1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $453.00
    اعلان ختم کریں

داغ کہو جب تم کہ ہے بیمار میرا - داغ دہلوی

کاشفی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 13, 2010

  1. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,371
    غزل
    (داغ دہلوی رحمتہ اللہ علیہ)

    کہو جب تم کہ ہے بیمار میرا
    تو کیوں کر دور ہو آزار میرا

    بُرائی میں بھی ہوگا کوئی مطلب
    وہ کرتے ذکر کیوں بے کار میرا

    مجھے کوسیں، بلا سے گالیاں دیں
    مگر وہ نام لیں ہر بار میرا

    کہوں گا حشر میں یہ کون ہیں کون
    مزا دے جائے گا انکار میرا

    قیامت ہے سُنے وہ سر جھکائے
    خدا کے سامنے اظہار میرا

    مجھے تم جانتے ہو داغ ہوں میں
    کہیں جاتا ہے خالی وار میرا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  2. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    مجھے کوسیں، بلا سے گالیاں دیں
    مگر وہ نام لیں ہر بار میرا
    واہ کیا خوب انتخاب ہے۔ بہت شکریہ!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,371
    شکریہ خوش رہیں۔۔
     
  4. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,633
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    کیا خوبصورت غزل ہے۔ شکریہ کاشفی صاحب!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر