ظہیر احمد ظہیر

  1. سید اسد معروف

    غزل اصلاح کے لئے=جذبات میں جل جائیں=

    آج ایک چھوٹی بحر کی غزل لکھنے کی کوشش کی ہے۔اصلاح کے لئے پیش کرتا ہوں۔ بحر کا تعین بھی کیجئے گا۔ شکریہ۔ جذبات میں جل جائیں حدت سے پگھل جائیں ہم تم نہ رہیں باقی اک نفس میں ڈھل جایئں اک بحر تخیل ہے جس سمت نکل جائیں ایسے نہ مجھے دیکھو ارماں نہ مچل جائیں دیکھیں تو بھلا کیسے سوچیں تو دہل جائیں وہ تو...
  2. ارشد چوہدری

    پردیس جا رہے ہیں مجھ کو بتا کے روئے

    الف عین صابرہ امین سید عاطف علی ظہیر احمد ظہیر محمّد احسن سمیع :راحل: ------------- پردیس جا رہے ہیں مجھ کو بتا کے روئے میرے رکے نہ آنسو جب پاس آ کے روئے ----------- وہ رخصتی سے پہلے آئے ہیں مجھ سے ملنے کاندھے پہ میرے سر کو پھر وہ ٹکا کے روئے --------- کرتے...
  3. عاطف سعد 2

    دستار بھی ہے سر پر

  4. ارشد چوہدری

    زمانے نے مجھ کو بہت ہے ستایا------------برائے اصلاح

    الف عین سید عاطف علی ظہیراحمدظہیر ----------- زمانے نے مجھ کو بہت ہے ستایا مگر ان کے آگے نہیں سر جھکایا ---------- ترا مجھ کو یا رب سہارا ہے کافی گدا بن کے تیرے میں در پر ہوں آیا ---------- تری میں کریمی پہ قربان جاؤں کیا فضل مجھ پر جو در پر بلایا -----------...
  5. ارشد چوہدری

    ہوئی جب سے مجھ کو محبّت نبی سے----برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر سید عاطف علی صابرہ امین ہوئی جب سے مجھ کو محبّت نبی سے نہیں کچھ شکایت رہی زندگی سے ------------- خدا سے تعلّق بنایا ہے میرا یوں آقا نے جوڑا مجھے بندگی سے -------- نبی کی محبّت نے روشن کیا دل منوّر ہے سینہ اسی روشنی سے ------- مسرّت سے...
  6. ارشد چوہدری

    درسِ توحید جو دنیا کو سکھایا جاتا-------برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر سید عاطف علی صابرہ امین محمّد احسن سمیع :راحل: ---------- فاعِلاتن فَعِلاتن فَعِلاتن فِعْلن ------------ درسِ توحید جو دنیا کو سکھایا جاتا رب ہے معبودِ حقیقی یہ بتایا جاتا ------- بتکدہ پھر نہ یہاں کوئی بھی بنتا ہرگز رب کے در پر جو زمانے کو جھکایا...
  7. ارشد چوہدری

    میں دیکھتا ہوں آج تجھ کو باہوں میں رقیب کی-----برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر سید عاطف علی محمّد احسن سمیع :راحل: ------------ میں دیکھتا ہوں آج تجھ کو باہوں میں رقیب کی گلہ کروں تو کیا کروں یہ بات ہے نصیب کی ------- وہ روٹھ کر چلا گیا خفا تھا اس غریب سے نصیب میں رہی نہیں ہے شکل اب حبیب کی ------------- دعا ہے...
  8. ارشد چوہدری

    ہم کو محفل میں اپنی بلاؤ کبھی-----برائے اصلاح

    الف عین محمّد احسن سمیع :راحل: محمد خلیل الرحمٰن ظہیراحمدظہیر صابرہ امین ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ہم کو محفل میں اپنی بلاؤ کبھی بات دل کی ہمیں بھی بتاؤ کبھی ---------- گر تمہارے بھی دل میں ہے چاہت مری کر کے اظہار اس کا دکھاؤ کبھی --------------- چُھپ کے ملنا...
  9. ریحان احمد ریحانؔ

    جہل اب جلوہ فگن ہے آئینہ خانوں کے بیچ

    شیخ جی بیٹھے ہوئے ہیں ایسے فرزانوں کے بیچ جیسا دیوانہ کوئی بیٹھا ہو دیوانوں کے بیچ مے کہاں کی، جام کس کا، کون ہے ساغر بکف محتسب بیٹھے ہوئے ہیں اب تو میخانوں کے بیچ تو کہ گل پیکر تھا تیرا جسم تھا عینِ بہار تو بھلا کیوں رہتا ہم سے سوختہ جانوں کے بیچ کوئی تو بولے کہ یہ دستِ ستم زنجیر ہو...
  10. ارشد چوہدری

    جمال تیرا بھلا نہ پائے--------برائے اصلاح

    ظہیراحمدظہیر عظیم صابرہ امین محمد خلیل الرحمٰن @محمّداحسن سمیع:راحل؛ ---------- جمال تیرا بھلا نہ پائے کسی کو تجھ سے ملا نہ پائے ----------- چھپی تھی اپنے جو بات دل میں وہ بات تجھ کو بتا نہ پائے ------- لکھے تھے نغمے جو چاہتوں کے کبھی وہ تجھ کو سنا نہ پائے...
  11. ریحان احمد ریحانؔ

    ہونٹوں پہ تبسم ہے آنکھوں میں نمی ہے

    ہونٹوں پہ تبسم ہے آنکھوں میں نمی ہے ہم پر دمِ رخصت یہ عنایت بھی بڑی ہے تم چاہو تو الفت سے گرا سکتے ہو اسکو یہ ترکِ تعلق کی جو دیوار کھڑی ہے کیا پوچھتے ہو شہرِ ستم گار کے حالات؟ ہر شے میں تفاوت ہے ہر دل میں کجی ہے وہ پھول بھی ہو جائیں گے کیا نذر خزاں کی! جن پھولوں پہ شبنم تری زلفوں کی پڑی ہے...
  12. ارشد چوہدری

    ہرگز کسی غریب کو رسوا نہ کیجئے-----برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر صابرہ امین محمد خلیل الرحمٰن محمّد احسن سمیع؛راحل؛ ------------- ہرگز کسی غریب کو رسوا نہ کیجئے دے کر خدا کے نام پہ چرچا نہ کیجئے --------- کوئی خطا سے پاک ہو ،ممکن نہیں ہے یہ لوگوں سے بات بات پہ جھگڑا نہ کیجئے --------- ایسے تو زخم آپ کا ہو...
  13. ارشد چوہدری

    ایسے تو کبھی مجھ سے چاہت نہ بیاں ہو گی-----برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر صابرہ امین محمد خلیل الرحمٰن محمّد احسن سمیع :راحل: ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ مفعول مفاعیلن مفعول مفاعیلن ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ایسے تو کبھی مجھ سے چاہت نہ بیاں ہو گی جب رعبِ حسن ہو اتنا ِ گنگ زباں ہو گی ----------- جتنی ہے مرے دل میں چاہت وہ تمہاری ہے...
  14. ارشد چوہدری

    دل محبّت سے تیری بھرا ہی نہیں-----------برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر صابرہ امین محمد خلیل الرحمٰن @محمّداحسن سمیع؛راحل؛ ------------ دل محبّت سے تیری بھرا ہی نہیں پیار اوروں کی خاطر بچا ہی نہیں ---------- تھے تو دنیا میں کتنے حسیں اور بھی میری آنکھوں میں کوئی جچا ہی نہیں ------- جس کو اپنوں نے دھوکے میں رکھا...
  15. ظہیراحمدظہیر

    آگہی سو غموں کا اک غم ہے

    احبابِ کرام! ایک سہ غزلہ آپ کے ذوق کی نذر ہے ۔ ان میں کچھ اشعار پرانے ہیں اور کچھ تازہ ۔ چند روز پہلے میردرؔد کا ایک شعر دیکھ کر اپنی ایک پرانی غزل یاد آئی اور پھر کچھ تازہ اشعار اس میں اضافہ ہوئے ۔ امید کہ کچھ اشعار آپ کو ضرور پسند آئیں گے ۔ گر قبول افتد زہے عز و شرف! ٭٭٭ آگہی سو غموں کا اک...
  16. ارشد چوہدری

    در پہ آیا ہوں تیرے میں بن کر گدا-----برائے اصلاح

    الف عین ظہیر احمد ظہیر محمد خلیل الرحمٰن محمّد احسن سمیع؛راحل؛ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ در پہ آیا ہوں تیرے میں بن کر گدا بخش دینا خطائیں اے میرے خدا ---------- تیری رحمت ہے غالب غضب پر ترے تُو نے قرآن میں ہے یہ خود ہی کہا --------- در پہ تیرے میں آیا ہوں اس حال میں...
  17. ارشد چوہدری

    مجھ کو جو غم ملا ہے اندر سے کھا رہا ہے------برائے اصلاح

    الف عین ظہیراحمدظہیر محمد خلیل الرحمٰن محمّد احسن سمیع :راحل: ------------ مجھ کو جو غم ملا وہ اندر سے کھا رہا ہے حالت ہے دل کی جیسے ڈوبا ہی جا رہا ہے ---------- تیری یہ زندگی ہے دنیا میں چار دن کی کس کام کا ہے تیرے جو کچھ بنا رہا ہے ------------ محشر میں...
  18. ارشد چوہدری

    ہم نے الفت کے تقاضوں کو نبھایا ہر دم----برائے اصلاح

    الف عین ظہیر احمد ظہیر محمد خلیل الرحمٰن محمّد احسن سمیع :راحل: ------------- ہم نے الفت کے تقاضوں کو نبھایا ہر دم دل میں تیری ہی محبّت کو بسایا ہر دم --------- ہم نے دنیا کی نگاہوں میں نگاہیں ڈالیں آیئنہ ہم نے زمانے کو دکھایا ہر دم ------------- ہم نے لوگوں کے...
  19. Khursheed

    ایک نظم میں منظر نگاری

    مسکراتے ہوئے سُرخ ہونٹوں تلے جگمگائے ترے موتیوں کی دمک جب میں تھک ہار کے پاس آیا ترے ہار بانہوں کے ڈالے گلے میں مرے اپنے ہاتھوں مرے بال بکھرا دیے گدگدائے تری چوڑیوں کی کھنک مسکراتے ہوئےسرخ ہونٹوں تلے۔۔۔۔۔ اک مصور کی جیسے ہو تصویر تم یا ہو جنت سے اتری کوئی حور تم میری مشتاق نظروں سے شرماؤ تم...
  20. ظہیراحمدظہیر

    اب تری یاد میں غم بھی ہوئے شامل میرے

    بہت عرصے کے بعد کچھ تازہ اشعار احبابِ محفل کی خدمت میں پیش کررہا ہوں ۔ خاکدان کا مجموعہ ترتیب دینے کے بعد بھی کئی ساری پرانی غزلیں اور نکل آئی ہیں ۔ چند ایک کی نوک پلک درست کرکے مکمل بھی کرلیا ہے اور وقتاً فوقتاً آپ کے ذوق کی نذر کرنے کا ارادہ ہے ۔ فی الحال یہ تازہ اشعار دیکھئے گا ۔ امید ہے کہ...
Top