بہزاد لکھنوی شبِ غم یہ کیوں مختصر ہوگئی - بہزاد لکھنوی

کاشفی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 20, 2013

  1. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,377
    نگاہِ حُسن
    (بہزاد لکھنوی)
    شبِ غم یہ کیوں مختصر ہوگئی
    الہٰی ابھی سے سحر ہوگئی

    کبھی آہ کی اور کبھی رو دیئے
    اسی حال میں رات بھر ہوگئی

    رہِ عشق میں صرف اتنا ہوا
    جبیں واقفِ رہ گزر ہوگئی

    مبارک، مرا دل تڑپنے لگا
    نظر آپ کی کارگر ہوگئی

    کبھی آہ ہم نے نہ کی درد میں
    کبھی گر ہوئی آنکھ تر ہوگئی

    نگاہِ محبت کی قسمت کُھلی
    نظر چار بار دگر ہوگئی

    مرے حال کی اُن کو بہزاد آہ
    نہ جانے کہ کیوں کر خبر ہوگئی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  2. قیصرانی

    قیصرانی لائبریرین

    مراسلے:
    45,875
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Festive
    بہت خوب :)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,377
    شکریہ!
     
  4. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    18,081
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    بہت اعلی
     

اس صفحے کی تشہیر