1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $453.00
    اعلان ختم کریں

فارسی شاعری می رقصم - شیخ عثمان مروَندی معروف بہ لال شہباز قلندر کی غزل

محمد وارث نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 6, 2009

  1. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شیخ سید عثمان شاہ مروَندی علیہ الرحمہ معروف بہ لال شہباز قلندر ایک جلیل القدر صوفی ہیں اور انکے نامِ نامی کی شہرت عالم گیر ہے۔ انکی ایک غزل بہت مشہور ہے جس کی ردیف 'می رقصم' ہے، اس غزل کا کچھ تذکرہ مولانا رومی کی ایک غزل جس کی ردیف 'می گردم' ہے لکھتے ہوئے بھی آیا تھا۔ اس وقت سے میں اس غزل کی تلاش میں تھا لیکن افسوس کہ نیٹ پر مکمل غزل کہیں نہیں ملی بلکہ اکا دکا اشعار ادھر ادھر بکھرے ہوئے ملے۔ کتب میں بھی تلاش کیا لیکن نہیں ملی۔

    اس سلسلے میں ایک عرض یہ کرونگا کہ بعض مشہور و معروف غزلیات جو صدیوں سے زبان زد عام ہیں، کتب میں نہیں ملتیں، مثلاً امیر خسرو علیہ الرحمہ کی نعت، نمی دانم چہ منزل بود شب جائے کہ من بودم، انکی غزلیات کے پانچوں دیوانوں میں نہیں ہے (بحوالہ خسرو شیریں بیاں از مسعود قریشی، لوک روثہ اشاعت گھر، اسلام آباد) اسی طرح مولانا رومی کی مذکورہ غزل، نہ من بیہودہ گردِ کوچہ و بازار می گردم، انکی غزلیات کے دیوان 'دیوانِ شمس' میں موجود نہیں ہے، مولانا کے یہ کلیات ایران میں تصحیح کے ساتھ شائع ہو چکے ہیں اور اسی دیوانِ سمش کا آن لائن ورژن ویب پر بھی موجود ہے، جس میں یہ غزل موجود نہیں ہے اور اسی طرح شیخ عثمان کی مذکورہ غزل بھی کہیں نہیں ملتی لیکن عام طور سے یہی مشہور ہے کہ یہ غزل شیخ عثمان کی ہے۔ اس غزل کے چار اشعار مجھے ویب سے ملے تھے، باقی اشعار نصرت فتح علی خان قوال کی گائی ہوئی ایک قوالی (امیر خسرو کی نعت نمی دانم) سے ملے ہیں اور یوں سات اشعار کی ایک غزل بہرحال بن گئی ہے جو احباب کی خدمت میں پیش کر رہا ہوں، مجھے پورا یقین ہے کہ اس غزل کے مزید اشعار بھی ہونگے، بہرحال تلاش جاری ہے۔

    غزل پیشِ خدمت ہے۔

    نمی دانم کہ آخر چوں دمِ دیدار می رقصم
    مگر نازم بہ ایں ذوقے کہ پیشِ یار می رقصم

    نہیں جانتا کہ آخر دیدار کے وقت میں کیوں رقص کر رہا ہوں، لیکن اپنے اس ذوق پر نازاں ہوں کہ اپنے یار کے سامنے رقص کر رہا ہوں۔

    تو ہر دم می سرائی نغمہ و ہر بار می رقصم
    بہ ہر طرزِ کہ می رقصانیَم اے یار می رقصم

    تو جب بھی اور جس وقت بھی نغمہ چھیڑتا ہے میں اسی وقت اور ہر بار رقص کرتا ہوں، اور جس طرز پر بھی تو ہمیں رقص کرواتا ہے، اے یار میں رقص کرتا ہوں۔

    تُو آں قاتل کہ از بہرِ تماشا خونِ من ریزی
    من آں بسمل کہ زیرِ خنجرِ خوں خوار می رقصم

    تُو وہ قاتل کہ تماشے کیلیے میرا خون بہاتا ہے اور میں وہ بسمل ہوں کہ خوں خوار خنجر کے نیچے رقص کرتا ہوں۔

    بیا جاناں تماشا کن کہ در انبوہِ جانبازاں
    بہ صد سامانِ رسوائی سرِ بازار می رقصم

    آجا جاناں اور دیکھ کہ جانبازوں کے گروہ میں، میں رسوائی کے صد سامان لیے سر بازار رقص کر رہا ہوں۔

    اگرچہ قطرۂ شبنم نہ پویَد بر سرِ خارے
    منم آں قطرۂ شبنم بہ نوکِ خار می رقصم

    اگرچہ شبنم کا قطرہ کانٹے پر نہیں ٹھہرتا لیکن میں وہ قطرۂ شبنم ہوں کہ نوکِ خار پر رقص کرتا ہوں۔

    خوش آں رندی کہ پامالش کنم صد پارسائی را
    زہے تقویٰ کہ من با جبّہ و دستار می رقصم

    واہ وہ رندی کہ جس کیلیے میں سیکنڑوں پارسائیوں کو پامال کر دوں، مرحبا یہ تقویٰ کہ میں جبہ و دستار کے ساتھ رقص کرتا ہوں۔

    منم عثمانِ مروندی کہ یارے شیخ منصورم
    ملامت می کند خلقے و من بر دار می رقصم

    میں عثمان مروندی کہ شیخ منصور (حلاج) میرے دوست ہیں، مجھے خلق ملامت کرتی ہے اور میں دار پر رقص کرتا ہوں۔

    اس شعر کیلیے ایک وضاحت یہ کہ شیخ عثمان کا نام شیخ عثمان مروَندی ہے لیکن یہ شعر نصرت فتح علیخان نے عثمان ہارونی کے نام کے ساتھ گایا ہے۔ میں نے اپنی سی کوشش ضرور کی کہ کہیں سے یہ علم ہو جائے کہ صحیح شعر کیا ہے اور یہ 'ہارونی' کیوں آیا ہے مصرعے میں لیکن افسوس کہ میرے پاس ذرائع محدود ہیں، یہ بھی علم نہیں ہو سکا کہ کیا 'ہارون' انکے کسی مرشد کا نام تھا جس کی طرف انہوں نے نسبت کی ہے۔

    بہرحال تحقیق کے دروازے کھلے ہیں، اس شعر بلکہ اس غزل کے دیگر اشعار کیلیے میں بھی سرگرداں ہوں اور دیگر اہلِ علم و فن و ہنر کو بھی دعوتِ عام ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 20
    • زبردست زبردست × 16
    • متفق متفق × 1
  2. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    13,929
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    یہ بھی ملاحظہ ہو:

    بہ گردِ مرکزِ خود صورتِ پرکار می رقصم
    محیطِ بے کرانم من قلندر وار می رقصم

    چو اندر این وجودے خود مقامِ یار می بینم
    ہزاراں پردہا چاکم ہزاراں‌ بار می رقصم

    منم بے تاب و بے صبرم قتیلِ نظرِ‌ بے باکم
    بچشمِ شوخِ آں‌ شوخے پئے دیدار می رقصم

    حیائے شانِ بے چُونم متاعِ کنز مخفی ام
    ز انوارِ تجلائے سرِ بازار می رقصم

    اگرچہ رشتہ جانے و جاناں سر پنہانم
    خوشا آں حلقہ گیسو کہ من بردار می رقصم

    جلائے آبِ شمشیرم ضیائے درِ مکنونم
    سراپا کیف و مستی ام قلندر دار می رقصم

    ولی را خود نمی دانم نثارِ‌لذت ہوئم
    اگرچہ لامکاں دارم پئے اظہار می رقصم

    از ولی الدین
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 15
    • زبردست زبردست × 9
  3. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    13,929
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    خواجہ عثمان ہارونی ،خواجہ معین الدین چشتی رحمۃ اللہ علیہ کے مرشد ہیں۔ تو کیا یہ ان کا کلام ہے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 9
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • زبردست زبردست × 1
    • متفق متفق × 1
  4. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    واللہ اعلم باالصواب، نظامی صاحب۔

    عام طور پر یہی مشہور ہے کہ یہ غزل شیخ عثمان مروندی لال شہباز قلندر کی ہے۔ چونکہ یہ اور اسی طرح کی بیسیوں مشہور غزلیں عوام اور بالخصوص قوالوں کی زبانوں پر ہیں سو ان میں یقیناً تحاریف بھی ہوئی ہیں، مصرعے اور اشعار بھی مختلف شکلوں میں ملتے ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 8
    • متفق متفق × 3
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  5. شاہ حسین

    شاہ حسین محفلین

    مراسلے:
    2,902
    بہت خوب غزل ہے جناب وارث صاحب اور تحقیق بھی قابل ستائش ہے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  6. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    نوازش شاہ صاحب۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  7. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,631
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    لاجواب کلام ہے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  8. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    قبلہ! اس خوبصورت انتخاب اور ترجمے کی شراکت کا بے حد شکریہ!
    حیرت یہ ہے کہ جس روز آپ نے یہ مراسلہ ارسال کیا تھا میں اس روز سیہون میں ہی تھا جہاں لال شہباز قلندر کا مزار ہے اور جب اس مراسلے پر شکریے کا بٹن دبایا تب حیدرآباد میں تھا۔ :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 2
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  9. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    بہت شکریہ فرخ صاحب اور فاتح صاحب۔

    فاتح صاحب گویا آپ کی وساطت سے ہماری بھی حاضری ہو گئی :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • دوستانہ دوستانہ × 2
  10. سید محمد نقوی

    سید محمد نقوی محفلین

    مراسلے:
    692
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    ملامت می کند خلقے و من بر دار می رقصم

    کیا خوب رقص ہوگا، واہ

    بہت عمدہ وارث صاحب
    شکریہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  11. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    فقط 'قیاس' ہی کیا جا سکتا ہے کہ 'شاعری' ہے :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  12. نبیل

    نبیل محفلین

    مراسلے:
    16,620
    جھنڈا:
    Germany
    موڈ:
    Depressed
    برادرم محمد وارث، کیا اس غزل کی گائیکی کی ویڈیو کا ربط مل سکے گا؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  13. خرم شہزاد خرم

    خرم شہزاد خرم لائبریرین

    مراسلے:
    10,810
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    نبیل بھائی میرے دل کی بات کر دی آپ نے شکریہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. خرم شہزاد خرم

    خرم شہزاد خرم لائبریرین

    مراسلے:
    10,810
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    نبیل بھائی پہلا شعر اس قوالی میں 7 منٹ اور 8 سیکنڈ پر ہے اس کو چیک کریں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 2
  15. خرم شہزاد خرم

    خرم شہزاد خرم لائبریرین

    مراسلے:
    10,810
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اور کچھ شعر اس میں ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 2
  16. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ برادرم، یہ غزل علیحدہ سے گائی ہوئی مجھے کہیں نہیں ملی، کچھ اشعار نصرت نے اپنی قوالی 'شب جائے کہ من بودم' میں گائے ہیں اور کچھ ادھر ادھر بکھرے ہوئے تھے جن کو میں نے اکھٹا کر دیا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  17. نبیل

    نبیل محفلین

    مراسلے:
    16,620
    جھنڈا:
    Germany
    موڈ:
    Depressed
    آپ درست فرما رہے ہیں۔ میں نے بھی نوٹ ‌کیا ہے کہ قوال اس پوری غزل کو گانے کی بجائے دوسری غزلوں میں اس غزل کے اشعار کا لقمہ دینا پسند کرتے ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
    • متفق متفق × 1
  18. مغزل

    مغزل محفلین

    مراسلے:
    17,597
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    وارث صاحب،
    آداب و سلامِ مسنون
    تو ہر دم می سرائی نغمہ و ہر بار می رقصم
    یہ مصرع میں نے یوں سنا اور پڑھا ہے
    ( صحت کوئی نہیں کہ محض انتخاب کی کتب میں دیکھا ہے )
    ’ تو ہر دم می سرا نغمہ کہ ہر دم می سرے رقصم ‘‘
    کیا یہ معنوی طور پر درست ہے ؟؟

    میں نے مکمل زمان ذکی تاجی قوال سے مکمل سن رکھی ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  19. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    مغل صاحب، ایسی مشہور و معروف غزلوں، اور بالخصوص جو صدیوں سے قوالوں کی تالیوں میں گونج رہی ہوں، انکی صحت کے بارے بات کرنا بہت مشکل ہے جب کہ وہ لکھی ہوئی بھی کسی کتاب میں نہ ملیں، نہ صرف اس غزل بلکہ اس طرح کی کئی غزلوں میں بے حد تغیرات ملتے ہیں سو کچھ نہیں کہا جا سکتا :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  20. مغزل

    مغزل محفلین

    مراسلے:
    17,597
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    سچ کہا صاحب۔ بہر حال میں بھی تلاش کرتا ہوں ۔دعا کیجے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2

اس صفحے کی تشہیر