آج کی دلچسپ خبر!

محمد عدنان اکبری نقیبی نے 'آج کی خبر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 22, 2017

  1. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    ملیحہ لودھی پانچ کامیاب ترین سفارتکار خواتین کی فہرست میں شامل

    [​IMG]
    اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی کا نام دنیا کیپانچ کامیاب ترین خواتین سفارتکاروں کی فہرست میں شامل کرلیا گیا ہے۔
    گزشتہ روزسفارتکاروں کے عالمی دن کے موقع پر روس کی سرکاری ویب سائٹ نے ملیحہ لودھی کا نام دنیا کی پانچ کامیاب ترین خواتین کی فہرست میں شامل کرلیا۔

    [​IMG]

    ویب سائٹ کے مطابق ملیحہ لودھی مسلمان ممالک میں مقبول ترین شخصیت ہیں۔
    واضح رہےڈاکٹر ملیحہ لودھی کو فروری 2015 میں پاکستان کی جانب سے اقوامِ متحدہ میں مستقل مندوب تعینات کیا گیا تھا اور اب تک وہ اس عہدے پر اپنی خدمات انجام دے رہی ہیں۔
    ملیحہ لودھی دو مرتبہ امریکا میں پاکستانی سفیر تعینات رہیں اور اس کے علاوہ وہ برطانیہ میں پاکستانی ہائی کمشنر کے عہدے پر بھی اپنے فرائض انجام دے چکے ہیں۔

    [​IMG]

    اس فہرست میں روس کی سفارت کار الیانورا مترافونوا سرِ فہرست ہیں جبکہ دیگر خواتین میں کرغیزستان کی روزا اتن بائیوا، ہالینڈ کی رینے جونزبوس اور سوئیڈن کی ایلوا ماڈال شامل ہیں۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 2
  2. لئیق احمد

    لئیق احمد محفلین

    مراسلے:
    10,825
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    مانچسٹر(نیوز ڈیسک)لوگ دوسروں کے جنازے میں تو شرکت کرتے ہیں لیکن ایک برطانوی بڑھیا نے اپنے ہی جنازے میں شرکت کا اہتمام کر لیا ہے۔ اخبار ’دی مرر‘ کے مطابق 93 سالہ خاتون ایتھل لیتھر کا کہنا ہے کہ وہ تقریبات میں شرکت کی بہت شوقین ہیں اور ان کی خواہش تھی کہ اپنی آخری رسوم میں بھی شرکت کریں۔ اپنی اس عجیب و غریب خواہش، اور اسے پورا کرنے کے لئے کیا طریقہ اپنایا، اس کے بارے میں بات کرتے ہوئے ایتھل نے بتایا”میں یہ برداشت نہیں کرسکتی کہ اپنی آخری رسومات کی تقریب میں شرکت سے محروم رہوں۔،ا س لئے میں نے فیصلہ کیاکہ مرنے سے پہلے ہی اپنی آخری رسومات کی تقریب منعقد کرلوں۔ میں نے ایک مقامی کلب میں اس تقریب کے لئے بکنگ کروالی ہے اور دوستوں عزیزوں سے کہہ دیا ہے کہ میری آخری رسومات میرے مرنے سے پہلے ہی ہوں گی۔
    [​IMG]
     
    • معلوماتی معلوماتی × 3
  3. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    امریکا میں غربت سے برا حال، گندگی کے ڈھیر
    [​IMG]
    جس وقت امیر ترین طبقہ پورے ملک کو نچوڑ کر اسے کھوکھلا بنا رہے ہیں اس وقت سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ کیا امریکا اپنے عوام کو معیاری معیارِ زندگی فراہم کرے گا یا نہیں۔ یہ بھی اہم بات ہے کہ اس مقصد کے حصول کیلئے کتنے لوگوں کو قربانی دینا پڑے گی۔ امریکا دنیا کا امیر ترین ملک ہے اور اس بات کا اندازہ اس کی خام جی ڈی پی دیکھ کر ہوتا ہے لیکن حالت یہ ہے کہ یہاں بچوں کی ایک بڑی تعداد کھلے گٹر اور جگہ جگہ پھیلے کچرے اور گندگی کی وجہ سے بیمار ہو رہے ہیں۔
    یہ انکشافات کسی اور نے نہیں بلکہ اقوام متحدہ کی جانب سے گزشتہ سال کرائے گئے ایک سروے کے نتیجے میں کیے گئے ہیں۔ اس سروے کیلئے امریکا کے غریب ترین علاقوں میں مسلسل دو ہفتوں تک ریسرچ کی گئی۔ اقوام متحدہ کی یہ رپورٹ گزشتہ سال دسمبر میں جاری کی گئی تھی۔

    [​IMG]

    رپورٹ کی تیاری کیلئے ماہرین کی ٹیم نے کیلیفورنیا، الاباما، جورجیا، مغربی ورجینیا اور واشنگٹن ڈی سی (دارالحکومت) کا دورہ کیا۔ اقوام متحدہ کے نمائندہ برائے غربت اور حقوق انسانی فلپ آلسٹن نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ امریکا دنیا کے امیر ترین، انتہائی طاقتور اور ٹیکنالوجی کے لحاظ سے جدید ترین ملکوں میں سے ایک ہے لیکن تمام تر دولت، طاقت اور ٹیکنالوجی کے باوجود ان مسائل کو حل نہیں کیا جا رہا جن کی وجہ سے ملک کے 4؍ کروڑ افراد بدستور غربت میں زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔
    انہوں نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ میں نے لاس اینجلس میں کئی غریب لوگوں سے ملاقات کی، سان فرانسسکو میں ایک پولیس والا بے گھر افراد کے ایک گروپ سے کہہ رہا تھا کہ اس جگہ سے ہٹ جائو، لیکن اس کے پاس اس سوال کا کوئی جواب نہیں تھا جو ان بے گھر افراد نے پوچھا کہ یہاں سے ہٹ کر کہاں جائیں۔ انہوں نے کہا کہ ان ریاستوں میں کئی ایسے مقامات ہیں جہاں کچرا کھلے عام پھینکا جاتا ہے اور مقامی حکومتیں حفظانِ صحت کو اپنی ذمہ داری نہیں سمجھتیں، غریب لوگوں کیلئے متعارف کرائے جانے والے ہیلتھ پروگرامز میں دانتوں کے مسائل کی سہولت شامل نہیں، ان ریاستوں میں خاندانی نظام تباہ ہو رہا ہے، شرح اموات بڑھ رہی ہے۔
    رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گٹر کے کچرے اور غلاظت سے بھرے ہوئے علاقے لائونڈیس کائونٹی الاباما میں موجود ہیں جس سے صحت کے مسائل پیدا ہو رہے ہیں خصوصاً ہوک ورم نامی بیماری پیدا ہو رہی ہے جو عمومی طور پر غریب ترین ملکوں میں پائی جاتی ہے۔ اس کے علاوہ دیکھیں تو نیویارک کا سب وے سسٹم زوال کا شکار ہے کیونکہ یہاں سرمایہ کاری نہیں کی جا رہی اور کرپشن زیادہ ہے۔
    گزشتہ موسم سرما کی بات کی جائے تو زیر زمین ایک ٹرین پھنس گئی جس کی وجہ سے کئی مسافروں کو بغیر ایئر کنڈیشن کے اندھیرے میں ایک گھنٹے تک مدد کیلئے آہ و بکا کرنا پڑی۔

    [​IMG]

    دارالحکومت واشنگٹن کی بات کی جائے تو میٹرو ٹرین ہمیشہ دیر سے آتی ہے اور ناقابل بھروسہ بھی ہے، ٹرینوں میں آگ لگنے کے واقعات بڑھ رہے ہیں، پل ٹوٹ رہے ہیں، بالٹی مور میں درجنوں اسکولز ایسے ہیں جہاں سردیوں میں گرمی پیدا کرنے کا کوئی نظام نہیں جبکہ امریکی انتظامیہ جس ایک شعبے میں زیادہ سرمایہ کاری کر رہی ہے وہ جیل خانہ جات کا شعبہ ہے یا پھر جنگ کا۔
    ملک میں طلبہ کی ایک بڑی تعداد 14؍ کھرب ڈالرز کی مقروض ہے۔ جہاں تک صحت کے شعبے کی بات کی جائے تو 45؍ ہزار لوگ صرف اسلئے سالانہ مر رہے ہیں کیونکہ ہیلتھ کیئر تک رسائی ان کے بس کی بات نہیں۔ اس کے بعد پانی کے مسائل آتے ہیں، ملک بھر میں ایسی تین ہزار کائونٹیز ہیں جہاں پانی کی سپلائی میں سیسہ پایا گیا ہے لیکن مسائل کے حل کیلئے کچھ نہیں کیا جا رہا۔

    حیرانی کی بات یہ ہے کہ مسائل سے بھرپور علاقوں میں زیادہ سے زیادہ عمر کی حد 64؍ سال ہے جبکہ صرف 6؍ گھنٹے دور موجود امیروں کے علاقے میں زیادہ سے زیادہ عمر کی حد 82؍ سال ہے۔ ایسے ملک میں یہ باتیں حیران کن نہیں جہاں امیر لوگ امیر ترین جبکہ غریب غریب ترین ہوتے جا رہے ہیں جبکہ متوسط طبقہ تباہ ہو رہا ہے۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 3
    • متفق متفق × 1
  4. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    دنیا کے مختلف امیر ترین افراد کی بے پناہ دولت

    [​IMG]
    دنیا کے مختلف ملکوں میں اگر ان ہی کے ملکوں کے امیر ترین افراد کی حکومت قائم کر دی جائے تو یہ اپنی دولت سے کئی دنوں تک پورا ملک چلا سکتے ہیں۔
    یہ دلچسپ سروے بلوم برگ کی جانب سے کیا گیا ہےجس میں بتایا ہے کہ مختلف ملکوں کے امیر ترین افراد اپنے ملک کی عوام کو کتنے دن تک کھانا پینا فراہم کرسکتے ہیں۔

    [​IMG]

    اس سروےکے مطابق امریکی ارب پتی جیف بیزوس کے پاس ننانوے ارب ڈالر کی رقم ہے جس سے وہ اکیلے 5روز تک امریکا کو چلا سکتے ہیں۔

    [​IMG]

    امانشیو اورٹیگا 48 دن تک اسپین کو اپنی جیب سے چلا سکتے ہیں۔

    [​IMG]

    فرانس کے برنارڈ آرنالٹ کے پاس فرانس کے 15دن کا خرچہ موجود ہے۔

    [​IMG]

    کارلوس سلم کو اگر میکسیکو دے دیا جائے تو ان کی عوام کو 82 دن تک فکر کی کوئی ضرورت نہیں۔

    [​IMG]

    دنیا کے سب سے بڑے ملک چین کو جیک ما نامی ارب پتی 4دن تک چلا سکتا ہے۔

    [​IMG]

    سوا ارب سے زائد آبادی کے ملک بھارت کو مکیش امبانی کے حوالے کر دیا جائے تو وہ اسے اکیلے 20دن تک ملک کو چلا سکتے ہیں۔

    [​IMG]

    ہانگ کانگ کواگر، لی کا شینگ کے سپرد کیا جائے تو وہ 191 دن تک اسے اپنے خزانے سے چلا سکتے ہیں۔

    [​IMG]

    برازیل کے خورخے پاولو لیمان کے پاس اپنے ملک کا 13دن کا خرچہ پانی موجود ہے۔

    [​IMG]

    اٹلی کے جیووانی فرارو اور اہل خانہ9 دن تک اٹلی کو چلا سکتے ہیں۔

    [​IMG]

    اور جرمنی کے ڈائٹر شوارز 5دن تک اپنے ملک کا خرچہ اپنی جیب سے پورا کر سکتے ہیں۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 4
    • زبردست زبردست × 1
  5. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    مردوں کے سامنے بغیر آستین کے کپڑے پہننا عورت کی ذلت ہے:سابق کینیڈین وزیراعظم

    [​IMG]

    کینیڈا کی سابق وزیراعظم کیم کیبل نے خاتون ٹی وی میزبانوں کو مردوں کے سامنے بغیرآستین کے والے کپڑوں پہننے پر تنقید کانشانہ بنایاہے۔سابق وزیراعظم کی سوشل میڈیا سائٹ ٹوئٹرپر ان کے پیغام سے بحث چھڑ گئی ہے جس میں انھوں نے کہاتھاانھیں سوٹ پہنے مردوں کے سامنے ٹی وی پر بغیر آستین کے کپڑے پہنی خواتین عجیب لگتی ہے۔انھوں نے اپنے پیغام میں کہاکہ وہ مردوں کے سامنے بغیر آستین کپڑے پہننا عورت کی ذلت محسوس کرتی ہیں۔ان کاکہناتھا کہ ننگے بازوں کے ساتھ خواتین کی ساکھ اورعزت پرحرف آتا ہے.ان کے ٹوئٹر کی ٹوئیٹ پر تنقید کرتے ہوئے لوگوں نے کہا کہ عورت کے صلاحیتوں پر توجہ مرکوز رکھنی چاہیے نہ کہ ان کے کپڑوں پر ۔کسی نے کہا سابق امریکی صدر بارک اوباما کی بیوی مشل اوباما متعدد باربغیر آستین کے کپڑے پہنتی ہے جبکہ کسی نے کینیڈا کی وزیراعظم پر ذاتی حملہ کرتے ہوئے کہاانھوں نے خود بحیثیت اٹارنی جنرل 1990بھڑکیلے کپڑے زیب تن کیے تھے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  6. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    دہی دل کے دورے کے خطرا ت کم کرسکتی ہے، نئی تحقیق
    [​IMG]
    نئی تحقیق میں کہا گیا ہے کہ ہفتے میں دو بار دہی کھانے سے دل کے دورے کے خطرات کو 30فیصد تک کم کیا جاسکتا ہے۔
    برطانوی اخبار ’’ڈیلی میل‘‘ کے مطابق ہفتے میں کم از کم دو مرتبہ بھرپور دہی کھانے سے ہارٹ اٹیک یا اسٹروک کے خطرات خواتین میں 30فیصد جبکہ مردوں میں 19فیصد تک کم ہوجاتے ہیں۔
    محققین کو یقین ہے کہ قدرتی دہی کے خمیر اور کیلشیم کے مواد کا مجموعہ دل کو لاحق خطرات میں مفید ثابت ہوتا ہے۔
    تحقیق کے نتائج سے پتہ چلا ہے کہ دہی کا تنہا استعمال یا فروٹ ، سبزیوں اور اناج کے ساتھ خوراک کا مستقل حصہ بنانا دل کی صحت کے لئے فائدہ مند ہوسکتا ہے۔

    [​IMG]

    تحقیق کے دوران 30سے 55سال عمر کی 55ہزار سے زائد خواتین جبکہ 40سے 75سال کے 18ہزار سے زائد مردوں کا تجزیہ کیا گیا، تحقیق میں شامل یہ تمام افراد 30سال تک کے عرصے سے بلند فشارِ خون(ہائی بلڈ پریشر)کا شکار تھے۔
    شرکاء سے اُن کی روزمرہ خوراک سے متعلق ایک سوالنامہ پُر کرایا گیا ، جسے محققین نے دہی کے اوسط استعمال کا اندازہ لگانے کے لئے استعمال کیا۔
    تحقیق کے نتائج امریکن جنرل آف ہائپرٹینشن میں شائع کیے گئے ہیں۔واضح رہے کہ صرف امریکا میں ہرسال 15لاکھ سے زائد افراد دل کے دورے یا اسٹروک کا شکار ہوتے ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • متفق متفق × 1
  7. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    بھارت:خود کو مرد ظاہر کرکے خاتون نے دو شادیاں کرلیں

    [​IMG]

    بھارت میں ایک خاتون نےمرد کا روپ دھار کر دوعورتوں سے شادی کرلی جبکہ جہیز کے لئے اُنہیں تشدد کا نشانہ بھی بنایا۔
    بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست اترپردیش کے شہر بجنور کی رہائشی سوئٹی سین بچپن ہی سے لڑکا بن کر رہتی تھی، 2013ء میں اُس نے کرشنا کے نام سے فیس بک پر اکاؤنٹ بنایا اور مردانہ روپ میں اپنی تصاویر پوسٹ کیں۔
    پولیس کاکہنا ہے کہ سوئٹی سین نے سوشل میڈیا پر کئی خواتین سے دوستی کی جبکہ 2014ء میں خود کو علی گڑھ کے ایک بزنس مین کا بیٹا ظاہر کرکے ریاست اُتراکھنڈ کی ڈبل ماسٹرز خاتون کامینی سے شادی کرلی۔
    شادی کے بعد سوئٹی نے جہیز کے لئے کامینی کو مارنا پیٹنا شروع کردیا اور مبینہ طور پر اُس کے گھر والوں سے ساڑے 8لاکھ روپے وصول کرلئے۔
    کامینی نے میڈیا کو بتایا کہ سوئٹی سین شادی کے بعدخود کو مردظاہر کرنے کے لئے سگریٹ اور شراب نوشی بھی کرتی تھی۔
    پولیس کے مطابق سوئٹی سین نے دوسال بعد ایک اور خاتون نیشا سے شادی کی اور کرائے کے گھر میں دونوں بیویوں کو ساتھ رکھا تاہم نیشا کو شک ہوگیا کہ مرد سمجھ کرجس سے شادی کی ہے وہ مرد نہیں بلکہ عورت ہے تو اُس نے تھانے میں رپورٹ درج کرادی، جس پر پولیس نے سوئٹی سین کو گرفتار کرکے جعلسازی اور دھوکا دہی کا مقدمہ درج کرلیا۔
    دوان تفتیش سوئٹی سین نے پولیس کو بتایا کہ وہ بچپن ہی سے لڑکوں جیسے کپڑے پہنتی اور ہیئراسٹائل رکھتی تھی۔
    پولیس کا کہنا ہے کہ سوئٹی سین کے گھروالوں کو بھی تلاش کیا جارہا ہے کیونکہ دونوں شادیوں کے وقت وہ بھی تقریب میں موجودتھے جبکہ شادی کے بعد وہ اُس کے گھر بھی گئے تھے۔
     
    • زبردست زبردست × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  8. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    21,121
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    انتہائی افسوسناک!

    [​IMG]
    [​IMG]
     
    • غمناک غمناک × 4
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  9. عبید انصاری

    عبید انصاری محفلین

    مراسلے:
    840
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    آہ! طاؤس ورباب آخر
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  10. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    لاہور میں نئی اور پرانی گاڑیوں کا رنگا رنگ موٹرشو
    [​IMG]
    لاہور میں نئی اور پرانی گاڑیوں کا رنگا رنگ موٹر شو سجا جس میں کار لورز کی بڑی تعداد نے بھرپور شرکت کی۔

    [​IMG]

    خوبصور ت اور دلفریب کار شو، منچلے ہیوی بائیکس بھی لے کر پہنچ گئے، نئے اور پرانے ماڈلز کی چمچماتی گاڑیوں کے موٹر شو نے ایسا سحر طاری کیا کہ دیکھنے والے دیکھتے ہی رہ گئے، کسی نے سلفیاں بنائیں تو کوئی موٹربائیکس اور کاروں کی تصویریں بناتا دکھائی دیا۔

    [​IMG]

    شرکاء نےموٹر شو کے انعقاد کو سراہا، ان کا کہنا تھا کہ ایسے ایونٹس سے گاڑیوں کے بارے میں بھرپور معلومات میسر آتی ہیں۔

    [​IMG]

    موٹر شو میں نئے ماڈلز کے ساتھ کلاسک گاڑیاں بھی رکھی گئی تھیں، جن میں شرکاء نے گہری دلچسپی لی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 2
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  11. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    سعودی عرب: پہاڑوں پر کُندہ اونٹوں کے پراسرار نقوش دریافت

    [​IMG]

    ماہرین آثار قدیمہ نے سعودی عرب کے پہاڑوں پر اونٹوں کے پراسرار نقوش دریافت کیے ہیں جو بلند پہاڑوں پر کندہ کر کے بنائے گئے ہیں۔
    برطانوی اخبار ڈیلی میل کے مطابق سعودی عرب کےشمال مغربی صوبے الجوف کی پہاڑیوں پر دریافت ہونے والے اونٹوں کے نقوش 2 ہزار سال پرانے ہیں جن میں سے کچھ نامکمل ہیں۔

    [​IMG]

    ماہرین آثار قدیمہ اس دریافت پر حیرت زدہ ہیں کیونکہ الجوف ایک صحرائی علاقہ ہے اور وہاں اس قسم کی قدیم باقیات یا نقوش کا ملنا ناممکن ہے۔
    یہ دریافت سعودی اور فرانسیسی ماہرین آثارقدیمہ کی ایک مشترکہ ٹیم نے کی ہے۔ جن کا کہنا ہے کہ الجوف کے صحرائی علاقےسے برآمد ہونے والے نقوش اس بات کی نشاندہی کرتے ہیں کہ وہاں کسی زمانے میں تہذیب کا وجود تھا۔

    [​IMG]

    سعودی کمیشن برائے سیاحت اور قومی ورثہ کی رپورٹ کے مطابق 56 مقامات پر ’راک آرٹ‘ دریافت کیا گیا ہے جن میں الجوف اور تبوک بھی شامل ہیں۔
    رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ پہاڑوں پرکندہ مجسموں میں ایک جگہ اونٹ اور گدھے کا مجسمہ بھی ملا ہے۔

    [​IMG]

    ماہرین آثار قدیمہ کا کہنا ہے کہ دریافت ہونے والے تمام مجسمے تاریخی اہمیت کے حامل ہیں لیکن اونٹ کے ساتھ گدھے کا مجسمہ انتہائی منفرد ہے کیونکہ اس سے قبل قدیم دور کے آثار میں گدھے کا نقش یا مجسمہ کبھی نہیں ملا۔

    [​IMG]

    2 ہزار سال گزر جانے کے باعث یہ مجسمے خراب اور نامکمل ہیں لیکن بعض اب بھی بہتر حالت میں موجود ہیں۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 3
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  12. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    بیوی کو شوارمہ دلانے سے انکار کرنا شوہر کو مہنگا پڑ گیا

    [​IMG]

    اکثر اوقات دنیا بھر سے میاں بیوی کے کشیدہ تعلقات پر مبنی کئی واقعات سامنے آتے رہتے ہیں جس میں شوہر اور بیوی چھوٹی چھوٹی باتوں پر طلاق دینے یا مانگنے سے بھی گریز نہیں کرتے۔
    ایسا ہی ایک واقعہ مصر میں دیکھنے کو ملا جہاں شوارمہ نہ دلانے پر چالیس دن کی دلہن نے شوہر سے طلاق لینے کا فیصلہ کرلیا۔تفصیلات کے مطابق مصری خاتون سمیحہ نے عدالت میں اپنے شوہر کو کنجوس قرار دے کر طلاق لینے کے لیے درخواست جمع کرادی ہے، طلاق کی درخواست پر سماعت اگلے ہفتے ممکن ہے۔
    مصری خاتون کا کہنا تھا کہ جوس پلانے کے بعد شوارمہ کھانے کو کہا تو شوہر نے فضول خرچی کا الزام لگا کر بد تمیزی کی۔اس خاتون نے بتایا کہ چالیس روز قبل ہماری شادی روایتی طور پر والدین کی پسند سے ہوئی تھی اور میری پہلی ملاقات محض دو ماہ قبل شادی کی تاریخ رکھنے کی تقریب کے دوران ہوئی اس لیے مجھے شوہر کے مزاج اور ان کی کنجوس طبیعت کا اندازہ نہیں ہوسکا تھا جس کی وجہ سے شادی کے محض چالیس دن بعد ہی مسائل پیدا ہو گئے ہیں اور بخیل طبیعت کے باعث اب میرے لیے اپنے شوہر کے ساتھ رہنا ناممکن ہوگیا ہے اس لیے طلاق جیسا انتہائی قدم اُٹھایا ہے۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 5
    • غمناک غمناک × 1
  13. یاز

    یاز محفلین

    مراسلے:
    8,176
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    یوں شوارمے کی بھی بچت ہوئی اور جان بھی چھوٹی۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 3
  14. زیک

    زیک محفلین

    مراسلے:
    28,899
    جھنڈا:
    UnitedStates
    موڈ:
    InLove
    شاورما
     
    • معلوماتی معلوماتی × 5
  15. یاز

    یاز محفلین

    مراسلے:
    8,176
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    بہت شکریہ جناب اصلاح اور معلومات میں اضافے کے لئے۔
    تاہم مجھے لگتا ہے کہ سارے پاکستان کے بورڈز کی تدوین کرنی پڑے گی۔
    [​IMG]

    [​IMG]
     
    • متفق متفق × 5
  16. لئیق احمد

    لئیق احمد محفلین

    مراسلے:
    10,825
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اصل میں یہ لفظ شاورما ہی ہے ، مگر پاکستان میں اسے لوگ شوارما کہتے ہیں یہ غلط العوام ہے، اب چونکہ بہت بری طرح اس کا غلط تلفظ رائج ہوچکا ہے تو پاکستان میں اسے شوارما ہی کہنا پڑے گا۔
     
    • متفق متفق × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  17. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    استنبول، یہاں بلی عام لوگوں کی زندگی کا حصہ ہیں

    [​IMG]

    ترکی کے سب سے بڑے شہر استنبول کی مرکزی شاہراہوں کے پیچھے تنگ گلیوں میں چھتوں اور کھڑکیوں پر بلی نظرآنا عام بات ہے۔ اگر آپ استنبول جائیں تو آپ کویہ بلی گھروں کے دروازوں کے باہر اور ہر نکڑ پر آرام کرتی نظر آئیں گی۔

    [​IMG]

    دھوپ تاپتی اور ادھر ادھر خوراک کی تلاش میں پھرتی یہ بلی یورپ کے اس سب سے بڑے شہر کی روزمرہ زندگی کا اٹوٹ انگ ہیں۔ یہ ہر جگہ موجود ہوتی ہیں ، یہاں تک کہ بلند و بالا عمارتوں میں موجود دفاتر بھی ان کی پہنچ سے باہر نہیں اور تو اور یہ آپ کو اونچے اونچے اسٹولز پربھی محو خواب نظر آجائیں گی۔

    [​IMG]

    دکاندار اور مقامی لوگ اپنے علاقوں کی بلیوں کو ناموں سے جانتے ہیں اور ا ن کے قصے اس طرح سناتے ہیں جیسے اپنے دوست کے بارے میں گفتگو کررہے ہوں۔ استنبول کے بعض شہری انھیں سرد راتوں کی شدت سے بچانے کے لیے خصوصی انتظامات کرتے ہیں۔

    [​IMG]

    بعض افراد تو انھیں اپنے گھر لے جاتے ہیں۔ پالتوں جانوروں کی دکان میں کام کرنے والے ایک شخص کا کہنا تھا کہ بلیوں کے معاملے میں لوگ پیسوں کی پرواہ نہیں کرتے ۔

    [​IMG]

    یہ لنگڑی ، نابینا یا پیٹ کی تکلیف میں مبتلا بلیوں کو لے جاکر جانوروں کے اسپتال میں ان کا علاج کراتے ہیں اور جب وہ صحت یاب ہوجاتی ہیں تو پھر انھیں گلیوں میں دوبارہ چھوڑ دیتے ہیں۔

    [​IMG]

    ایک مقامی خاتون ہیرڈریسر کا کہنا تھا کہ وہ فرست کے لمحات میں ایک قریبی پارک میں جاکر دوبلیوں کی دیکھ بھال کرتی ہیں، اس طرح وہ ذہنی سکون حاصل کرتی ہیں۔

    [​IMG]

    جبکہ کاغذ چننے والا ایک شخص اپنے ٹھیلے کے ایک کونے پر مرغی کا ابلا ہوا گوشت سڑک پر پھرنے والی بلیوں کے لیے لیکر آتا ہے۔ اس کا کہنا تھا کہ بلی پاک جانور ہیں ۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 3
  18. اے خان

    اے خان محفلین

    مراسلے:
    2,719
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    مجھے بھی بلیاں بہت پسند ہے.
     
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • متفق متفق × 1
  19. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    5,018
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    دبئی : بھارتی لڑکی نے 102زبانوں میں گانے کا ریکارڈ قائم کردیا
    دبئی میں رہنے والی بھارتی لڑکی نے102 زبانوں میں گانے گا کرگنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کے دو اعزازات اپنے نام کر لیے۔
    خلیج ٹائمز کے مطابق’ سچیترا ستیش ‘ نامی 12 سالہ بھارتی لڑکی نے25 جنوری کو دبئی میں بھارتی سفارت خانہ کی ایک تقریب میں اپنے فن کا مظاہرہ کیا اور گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کے دو اعزازات اپنے نام کر لیے، ایک یہ کہ 102 زبانوں میں گانے گائے اور دوسرا یہ کہ 6 گھنٹے تک وہ مسلسل گانے گاتی رہی۔

    [​IMG]

    سچیترا نے بھارت کے یوم جمہویہ کے موقع پر یہ عالمی ریکارڈ قائم کیا اور اسے تحفے کے طور پر بھارت کو پیش کیا۔
    اس کا تعلق بھارت کے ایک موسیقار گھرانے سے ہے۔ اس نے 8 سال کی عمر سے کلاسیکل موسیقی کا آغاز کیا اور 2016میں مختلف زبانوں میں گانے گانا شروع کر دیے۔
    میڈیا سے بات کرتے ہوئےانہوں نے بتایا کہ ’وہ ایک سال سےاس کنسرٹ کی تیاری کر رہی تھی جس میں انہوں نے مختلف زبانوں کے گانے بھی یاد کرنے شروع کر دیے تھے۔ ‘اس کے علاوہ وہ کئی بھارتی زبانوں میں گانے پہلے بھی گاتی رہی ہیں جن میں ہندی، ملیالم اور تامل اور انگریزی شامل ہے۔

    [​IMG]

    سال2017میں سچیترا نے جاپانی زبان میں گانا گیا جو اس نے اپنے والد کے ایک جاپانی دوست سے سیکھا تھا۔ اس کے بعد اس نے عربی میں گانے گائے اورپھر فلپائنی زبان میں بھی گائے۔
    سچیترا نے بتایا کہ مجھے ایک گانا سیکھنے اور یاد کرنے میں دو گھنٹے لگتے ہیں اور اگر اس کا تلفظ آسان ہوتو صرف آدھے گھنٹے میں بھی گانا یاد ہوجاتا ہے۔
    اس کے علاوہ اس نے بتایا کہ کسی مشکل گانے کو یاد کرنے کے لیے وہ اسے بار بار سنتی ہے۔ فرانسیسی، ہنگری اور جرمن زبان کے گانے یاد رکھنا سب سے زیادہ مشکل کام ہے اور انہیں یاد کرنے میں کبھی کبھی دو دن بھی لگ جاتے ہیں۔

    [​IMG]

    سچیترا سے قبل ومانیہ کی گلوکارہ اینڈرے گوگن نے مسلسل 3 گھنٹےتک گانا گانے کا ریکارڈ قائم کیا تھا جو سچیترا نے توڑ دیا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  20. لئیق احمد

    لئیق احمد محفلین

    مراسلے:
    10,825
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اور چھ گھنٹوں تک گانے سننے والوں کا کیا بنا ؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 3

اس صفحے کی تشہیر