شیفتہ پھر محّرک ستم شعاری ہے ۔ شیفتہ

فرخ منظور نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 25, 2013

  1. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,666
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    پھر محّرک ستم شعاری ہے
    پھر انہیں جستجو ہماری ہے
    پھر وہی داغ و دل سے صحبت گرم
    پھر وہی چشم و شعلہ باری ہے
    پھر وہی جوش و نالہ و فریاد
    پھر وہی شورِ آہ و زاری ہے
    پھر خیالِ نگاہِ کافر ہے
    پھر تمنائے زخم کاری ہے
    پھر وہاں طرزِ دلنوازی ہے
    پھر یہاں رسمِ جاں نثاری ہے
    پھر وہی بے قراریِ تسکیں
    پھر ہمیں اس کی یادگاری ہے
    پھر ہمیں کام کچھ نہیں تم سے
    پھر وہی وضع گر تمہاری ہے
    شیفتہ پھر ہے ننگ عزت سے
    پھر وہی ہم ہیں اور خواری ہے
    (نواب مصطفیٰ خان شیفتہ)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2

اس صفحے کی تشہیر