سماجی مسائل پہ اشعار

جاسمن نے 'اشعار اور گانوں کے کھیل' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اکتوبر 11, 2018

  1. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    سائینس والے تابڑ توڑ ہر زمرہ میں جا جا کے دھاگے کھول رہے ہیں۔:) حد یہ کہ شعر و شاعری میں بھی دندناتے چلے آئے۔ :Dکیمیا پہ اشعار تو کبھی ارتقاء پہ اشعار:)
    سو ہم نے سوچا کہ ہم بھی کیوں نہ اپنے مضمون و میدان میں شاعری کا دھاگہ کھولیں۔:)
    آپ کو کسی شعر میں لگے کہ یہ شعر کسی اور یا مزید کسی سماجی مسئلہ کا احاطہ کر رہا ہے تو نشاندہی کریں۔:)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  2. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اقربا پروری، بدعنوانی وغیرہ
    ہر شاخ پہ اُلو بیٹھا ہے
    انجامِ گلستاں کیا ہوگا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  3. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    بوڑھوں کے مسائل
    اب جوانی کیا گئی، سو درد پیدا ہوگئے
    تُو ہی اے پیری بتا ہم کیا تھے اور کیا ہوگئے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • متفق متفق × 1
  4. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    سماجی تعلقات میں مسائل
    چمن میں جاکے یہ کس نے شگوفہ چھوڑا ہے
    کہ آج تک گل و بلبل میں بول چال نہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  5. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    چائلڈ لیبر
    وہ کون ہے جو ِانھیں کھیلنے نہیں دیتا
    یہ کم سنی میں جو روزی کمانے لگتے ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  6. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    سماجی مسائل
    آپ کس سمت سے نکلیں گے بچا کے دامن
    حادثے راہ میں ملتے ہیں فقیروں کی طرح
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 2
  7. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    غربت، گداگری
    ڈھانچوں کے ایک ڈھیر کی گنتی سے فائدہ
    کیوں ہورہی ہیں شہر میں مردم شماریاں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  8. فیصل عظیم فیصل

    فیصل عظیم فیصل محفلین

    مراسلے:
    3,372
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    چوروں کی سبھا چن کے کہو ملک بنے گا
    اسلام کی ملت کے مقدر کا ستارہ ۔۔۔؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
  9. سحرش سحر

    سحرش سحر محفلین

    مراسلے:
    114
    جھنڈا:
    Pakistan
    سرمایہ دارانہ نظام:
    گندم امیر شہر کی ہوتی رہی خراب
    بیٹی کسی غریب کی فاقہ سے مر گئ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  10. سحرش سحر

    سحرش سحر محفلین

    مراسلے:
    114
    جھنڈا:
    Pakistan
    سماجی مسائل:
    چڑھتی رہیں مزار پہ چادریں تو بے شمار
    باہر جو اک فقیر تھا سردی سے مر گیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  11. سحرش سحر

    سحرش سحر محفلین

    مراسلے:
    114
    جھنڈا:
    Pakistan
    بے انصافی ..استحصال:
    بادل سے کھیلتی رہیں پختہ عمارتیں
    بجلی گری تو شہر کے کچے مکان پر
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  12. سید عاطف علی

    سید عاطف علی محفلین

    مراسلے:
    5,950
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    حادثے سے بڑا حادثہ یہ ہوا
    کوئی ٹھہرا نہیں حادثہ دیکھ کر
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  13. عرفان سعید

    عرفان سعید محفلین

    مراسلے:
    3,461
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Amused
    شعر و شاعری والے بھی تو کبھی سائنس کے زمروں میں پھڑپھڑا کے دیکھیں۔:):):)
     
    آخری تدوین: ‏اکتوبر 12, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  14. حمیرا عدنان

    حمیرا عدنان مدیر

    مراسلے:
    6,648
    جھنڈا:
    Kuwait
    موڈ:
    Angelic
    بے روزگاری

    اسلمؔ بڑے وقار سے ڈگری وصول کی
    اور اس کے بعد شہر میں خوانچہ لگا لیا

    اسلم کولسری
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  15. حمیرا عدنان

    حمیرا عدنان مدیر

    مراسلے:
    6,648
    جھنڈا:
    Kuwait
    موڈ:
    Angelic
    بےروزگاری

    کالج کے سب بچے چپ ہیں کاغذ کی اک ناؤ لیے
    چاروں طرف دریا کی صورت پھیلی ہوئی بیکاری ہے


    راحتؔ اندوری
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  16. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ادھورے آدمی
    اِس نئے زمانے کے آدمی ادھورے ہیں
    صورتیں تو ملتی ہیں،سیرتیں نہیں ملتیں
    اَپنے عہدے کو وہی لوگ بڑا کہتے ہیں
    جن کو اونچے پیمانے ہر رشوتیں نہیں ملتیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  17. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    غُربت
    وہ اکثر دن میں بچوں کو سلا دیتی ہے اس ڈر سے
    گلی میں پھر کھلونے بیچنے والا نہ آجائے
    محسن نقوی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  18. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    گداگری
    اب اس سے بڑھ کر کیا ہو وراثت فقیر کی
    بچوں کو اپنی بھیک کے پیالے تو دے گیا
     
    • زبردست زبردست × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  19. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    9,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    شہرکاری
    گھیرے رکھتے ہیں ہر اک سمت سے در بند فلیٹ
    چاند کی چاہ میں بے چین گلی رہتی ہے
    محمود شام
    مجموعہ: قربانیوں کا موسم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  20. رباب واسطی

    رباب واسطی محفلین

    مراسلے:
    251
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Chatty
    خون مزدور کا ملتا جو نہ تعمیروں میں
    نہ حویلی نہ محل اور نہ کوئی گھر ہوتا
    حیدر علی جعفری
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1

اس صفحے کی تشہیر