1. اردو محفل سالگرہ پانزدہم

    اردو محفل کی پندرہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

درد پیہم ہے کوئی ساعتِ راحت ہی نہیں

عاطف ملک نے 'آپ کی شاعری (پابندِ بحور شاعری)' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 29, 2020

  1. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,164
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    ایک اور کاوش اساتذہ کرام اور محفلین کی خدمت میں پیش ہے۔امید ہے اپنی رائےسے آگاہ کریں گے۔

    درد پیہم ہے کوئی ساعتِ راحت ہی نہیں
    میرے ہونٹوں پہ مگر حرفِ شکایت ہی نہیں

    کوئی خواہش نہیں دل میں کوئی حسرت ہی نہیں
    زندگی ایسی کہ جینے کی ضرورت ہی نہیں

    میں تجھے چاند جو کہتا ہوں تو سچ کہتا ہوں
    بخدا یوں بھی خوشامد مری عادت ہی نہیں

    چاہنے والوں کو ایسے بھی جھڑکتا ہے کوئی
    اے حسیں شخص تجھے پاسِ مروت ہی نہیں

    جب وہ بچھڑا تو یہ لگتا تھا کہ مر جائیں گے ہم
    اب وہ لوٹا ہے تو اس کی کوئی وقعت ہی نہیں

    پوچھ بیٹھا ہے تو سُن عشق ہے اب بھی تجھ سے
    کیسے کہہ دوں کہ مجھے تجھ سے محبت ہی نہیں

    ہر تعلق ہے یہاں طمع و غرض پر قائم
    صدق و اخلاص کی اس عہد میں قیمت ہی نہیں

    وہ تو ہر آن ہے آمادہءِ بخشش عاطفؔ
    ترے دامن میں کوئی اشکِ ندامت ہی نہیں


    عاطفؔ ملک
    فروری ۲۰۲۰​
     
    آخری تدوین: ‏فروری 29, 2020
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
    • زبردست زبردست × 3
  2. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    727
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    آہا! ۔۔۔ کیا کہنے ۔۔۔ سادہ اور بے ساختہ! مزا آگیا!
    بہت خوب، ماشاءاللہ اچھی غزل ہے۔
     
  3. عرفان سعید

    عرفان سعید محفلین

    مراسلے:
    6,703
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Mellow
    اعلی
    بہت عمدہ غزل ہے۔
     
  4. سید عاطف علی

    سید عاطف علی محفلین

    مراسلے:
    9,214
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    خوب ۔ لیکن شاید طَمَع کا تلفظ غرض کی طرح ہوتا ہے ۔
     
    • متفق متفق × 1
  5. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,164
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    بہت شکریہ :)
    بہت شکریہ:)
    شکریہ۔۔۔۔۔کیا اس طرح طمع والا مصرع بحر سے خارج ہو رہا ہے؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  6. سید عاطف علی

    سید عاطف علی محفلین

    مراسلے:
    9,214
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    اصولی طور پر لگ تو رہا ہے ۔ لیکن میرے نزدیک ، میں تسکین اوسط کی ریورس ٹیکنک تحریک اوسط کی بنیاد پر اسے بحر کے جائز حد میں سمجھتا ہوں ۔البتہ ہر لفظ درست بیٹھے تو اصل مزہ آتا ہے۔ یہ میرا ذاتی خیال یے۔ اعجاز بھائی کی رائے لے لیتے ہیں۔ الف عین ۔
    تحریک اوسط کوئی معیاری اصطلاح نہیں میری اپنی اختراع ہے۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 2
  7. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,653
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    واقعی اس طرف میرا دھیان نہیں گیا تھا عطف کی صورت میں درست تلفظ سمجھنے کے لئے کچھ زیادہ ہی غور کرنا پڑتا ہے جو میں نے نہیں کیا! ویسے قبول کیا جا سکتا ہے۔ ویسے اگر سقم دور کرنا چاہو تو محض 'صرف' سے کام چل سکتا ہے یعنی صرف غرض پر قائم
     
    • متفق متفق × 1
  8. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    727
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    مکرمی عاطف بھائی، آداب!
    آپ نے تسکین اوسط کا تذکرہ کیا تو اس سے استاذی سرور عالم راز صاحب کا اس عنوان پر ایک مضمون یاد آگیا جس کے مطابق تسکین اوسط محض افاعیلی نقشے بنانے کا عروضی قاعدہ ہے۔ خود شعر میں کسی لفظ کے متحرک حرف کو ساکن کرنے کے لئے استعمال نہیں کیا جاسکتا۔ یہ ساری بحث ایک شاعر کے کسی دوسرے فورم پر نَظَرِ کرم کو نَظْرِ کرم باندھنے پر ہوئی تھی، جس کا جواز مذکورہ شاعر صاحب نے تسکین اوسط کے قاعدے سے اخذ کرنے کی سعی کی تھی۔
    آپ کے مراسلے میں کیا اسی جانب اشارہ ہے؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  9. ظہیراحمدظہیر

    ظہیراحمدظہیر محفلین

    مراسلے:
    3,007
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    عاطف بھائی ، تسکینِ اوسط کا استعمال تو صرف عروضی اراکین پر کیا جاتا ہے ۔ اس اصول کو زبان کے لفظوں پر تو نہیں لاگو کیا جاسکتا ۔ یعنی اس بحر میں فعِلاتن کو تسکین اوسط کے ذریعے فع-لا-تن میں تبدیل کیا جاسکتا ہے ۔ لیکن شعر کے الفاظ کو پھر اس عروضی وزن پر بٹھانا ہو گا۔ شعر کے الفاظ کو البتہ تسکین اوسط کے ذریعے مسخ نہیں کیا جاسکتا ۔ ۔ فارسی شعرا نے فارسی شاعری میں بعض الفاظ کے ساتھ یہ روا رکھا ہے لیکن اردوشاعری میں تو یہ حرام ہے ۔ عروضی وزن پر بٹھانے کے لئے کسی لفظ کی حرکت میں تغیر نہیں کیا جاسکتا۔ لفظ کی ہیئت اور ساخت تو جوں کی توں استعمال ہوگی ۔
     
    آخری تدوین: ‏مارچ 3, 2020
    • متفق متفق × 1
  10. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,164
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    اس علمی گفتگو سے بہت فائدہ ہوا جس کیلیے ممنون ہوں۔
    ابھی کیلیے استادِ محترم کےمشورے پرعمل کرتے ہوئے مصرع کو یوں کر دیتا ہوں۔۔
    ہر تعلق ہے یہاں صرف غرض پر قائم
    اصل میں مجھ سے بھی یہی چوک ہوئی کی عطف کی وجہ سےحرکت کے باوجود مغالطہ ہوا کہ مصرع بحر میں ہی ہے۔
    محمد تابش صدیقی محمد خلیل الرحمٰن سے درخواست ہے کہ تدوین کر دی جائے۔
     
    آخری تدوین: ‏مارچ 4, 2020
    • دوستانہ دوستانہ × 2

اس صفحے کی تشہیر