شاعروں کا ڈوپ ٹیسٹ - از - محمد احمدؔ

محمداحمد نے 'آپ کی طنزیہ و مزاحیہ تحریریں' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ستمبر 2, 2016

  1. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,554
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    ہو سکتا ہے، ڈھونڈیے پلیز، خاصے کی چیز ہوگی :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  2. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,850
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    ’سمت‘ کے لیے منتخب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. ظہیراحمدظہیر

    ظہیراحمدظہیر محفلین

    مراسلے:
    2,513
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    احمد بھائی سمجھنے والے تو فورا سمجھ گئے تھے یہ تینوں اشارے ۔ ویسے آپ کے اُس جملے کی جام-عیت کی داد واجب ہے ۔ :):):)
    اور اس بات کی بھی داد دینی پڑے گی کہ آپ نے اتنے سارے "جاموں" کو چھوڑ کر مثال کے لئے صرف جام معشوق کو منتخب کیا۔ :)
    واہ سئیں وا!!
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  4. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,907
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    بہت شکریہ محترم!

    ممنون ہوں۔
     
  5. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,907
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    جام-عیت :)

    :)

    ہم تو غالب کے تطبع میں 'معشوق' کے آگے 'فریبی' بھی لکھ رہے تھے پھر کچھ سوچ کر رہ گئے۔ :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,555
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ڈھونڈنے سے میرا دماغ ہمیشہ کتابوں کی طرف جاتا ہے اور اب بھی ایسا ہوا۔خیال تھا کہ کسی دن لائبریری کا چکر لگے گا بچوں کے امتحانات کے بعد تو ڈھونڈوں گی۔آج ویسے ہی نیٹ پہ بٹن دبایا۔
    غزل
    (ساغر صدیقی)

    میں تلخیء حیات سے گھبرا کے پی گیا
    غم کی سیاہ رات سے گھبرا کے پی گیا

    اتنی دقیق شے کوئی کیسے سمجھ سکے
    یزداں کے واقعات سے گھبرا کے پی گیا

    چھلکے ہوئے تھے جام، پریشان تھی زلف یار
    کچھ ایسے حادثات سے گھبرا کے پی گیا

    میں آدمی ہوں، کوئی فرشتہ نہیں حضور
    میں آج اپنی ذات سے گھبرا کے پی گیا

    دنیائے حادثات ہے اک درد ناک گیت
    دنیائے حادثات سے گھبرا کے پی گیا

    کانٹے تو خیر کانٹے ہیں ان سے گلہ ہے کیا
    پھولوں کی واردات سے گھبرا کے پی گیا

    ساغر وہ کہہ رہے تھے کی پی لیجئے حضور
    ان کی گزارشات سے گھبرا کے پی گیا!




    خوب پی ہے اور خوب پلائی ہے :)

    شکریہ جناب

    صریرِ خامۂ وارث - میرا بلاگ
    نقش ہائے رنگ رنگ - فارسی شاعری مع اردو ترجمہ - فیس بُک
    محمد وارث, ‏اپریل 26, 2010 رپورٹبک مارک#2+ اقتباسجواب


    اس میں گھبرا کے پی گئی ہے،مسکرا کے نہیں۔شاید مجھے مغالطہ لگا تھا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  7. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,092
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    راز تو آپ نے افشا کیا ہے تابش بھائی!
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  8. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,092
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    ہاہاہاہا!
    بھائی آپ کی تحریر لاجواب ہے۔
     

اس صفحے کی تشہیر