فارسی شاعری خوبصورت فارسی اشعار مع اردو ترجمہ

محمد وارث نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 7, 2008

  1. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    گر بِمیرم در غمِ لَیلیِ خویش
    يا كِرامَ الحَیِّ لا تأسَوْا عَلَیّ
    (عبدالرحمٰن جامی)


    اگر مَیں اپنی لَیلیٰ کے غم میں مر جاؤں تو، اے قبیلے کے بُزُرگواران، مجھ پر سوگ مت کیجیے [گا]!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  2. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    سر در گِلیمِ تن شبم آمد به گوشِ روح
    يَا ايُّهَا الْمُزَمِّلُ قُمْ وَاشْرِبِ الصَّبُوح
    (عبدالرحمٰن جامی)


    شب کے وقت، کہ جب [میرا] سر تن کی چادر میں [لِپٹا ہوا] تھا، میری رُوح کے کان میں [صدا] آئی کہ: اے خود کو جامے میں لپیٹنے والے شخص! اُٹھو اور شرابِ صُبح‌گاہی نوش کرو!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  3. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    پردهٔ زُلفَت ز رُخ اُفتاد دُور
    أُزْلِفَتِ الْجَنَّةُ لِلْمُتَّقِين
    (عبدالرحمٰن جامی)


    تمہاری زُلف کا پردہ [تمہارے] چہرے سے دُور گِر گیا۔۔۔ [گویا] جنّت مُتّقیوں کے لیے نزدیک لے آئی گئی۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  4. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,554
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    رُباعی از مولانا رُومی

    در وصل، جمالش گُلِ خندانِ من است
    در ہجر، خیالش دل و ایمانِ من است
    دل با من و من با دل ازو در جنگیم
    ہر یک گوئیم کہ آں صنم آنِ من است


    وصل میں، اُس کا جمال میرا ہنستا مسکراتا کھلکھلاتا پُھول ہے۔ ہجر میں، اُس کا خیال، میرا دل، میرا دین ایمان ہے۔ دل میرے ساتھ اور میں دل کے ساتھ اُس کی وجہ سے لڑتے ہیں، کیونکہ دونوں ہی یہی کہتے ہیں کہ وہ صنم میرا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  5. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    رُویِ زمین ز تیرَگیِ مُنکِرانِ عشق
    مُحتاجِ شُست و شُویِ دِگر شُد کُجاست نوح

    (عبدالرحمٰن جامی)

    مُنکِرانِ عشق کی تِیرگی و تاریکی کے باعث رُوئے زمین [دوبارہ] اِک دیگر دُھلائی و صفائی کا مُحتاج ہو گیا ہے۔۔۔ نُوح کہاں ہے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  6. محمدعمرفاروق

    محمدعمرفاروق محفلین

    مراسلے:
    1,190
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    یا مکن با پیل بانان دوستی
    یا بنا کن خانه ای در خورد پیل​

    دوستي با پيل بانان يا مکن
    يا طلب کن خانه اي در خورد پيل​

    ان اشعار میں کونسا درست ہے؟
    گوگل تلاش سے دونوں کا سراغ ملتا ہے، پہلا بطورِ ضرب الامثال اور دوسرا گلستان سعدی سے ہے

    یا پھر دونوں ہی درست ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    معنائی لحاظ سے دونوں ہی دُرُست ہیں۔ فقط نُسخوں کا اختلاف معلوم ہوتا ہے۔
     
  8. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ای پَیکِ نامه‌بر که خبر می‌بری به دوست
    یا لَیْت اگر به جایِ تو من بودمی رسول
    (سعدی شیرازی)


    اے قاصدِ نامہ‌بَر کہ جو [میرے] یار کے نزد [میری] خبر لے جا رہے ہو!۔۔۔ اے کاش کہ تمہاری بجائے قاصِد و پَیام‌رساں مَیں ہوتا!
     
    آخری تدوین: ‏نومبر 22, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  9. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    هر که محرابِ ابروانِ تو دید
    عَجِّلُواْ بِالصَّلٰوة می‌گوید
    (عبدالرحمٰن جامی)


    جس بھی شخص نے تمہارے ابروؤں کی مِحراب دیکھی، وہ "نماز کی جانب جَلدی کیجیے" کہتا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  10. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    جامی آن رُخ ندید و عید گُذشت
    عیدِ او را خُجَسته چون خوانم

    (عبدالرحمٰن جامی)

    «جامی» نے وہ چہرہ نہ دیکھا اور عید گُذر گئی۔۔۔ میں اُس کی عید کو مُبارک کیسے پُکاروں؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ایک حدیثِ نبَوی کا منظوم ترجمہ:

    پهلَوان نیست آن که در کُشتی
    پهلَوانِ دِگر بِیَندازد
    پهلَوان آن بُوَد که وقتِ غضَب
    نفسِ امّاره را زبُون سازد

    (عبدالرحمٰن جامی)

    وہ شخص پہلوان نہیں ہے کہ جو کُشتی میں دیگر پہلوان کو [زمین پر] پھینک دے۔۔۔ پہلوان وہ ہے کہ جو خشْم و غضَب کے وقت نفسِ امّارہ کو پست و زبُوں کر ڈالے۔۔۔
     
    آخری تدوین: ‏نومبر 26, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  12. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    من مُفلِس از آن روز شدم کز حرَمِ غیب
    دیبایِ جمالِ تو به بازار برآمد
    (سعدی شیرازی)


    میں مُفلِس اُس روز سے ہوا [ہوں] کہ جب حرَمِ غَیب سے تمہارے جمال کا قیمتی و نفیس ریشمی کپڑا بازار میں آیا اور ظاہر ہوا [تھا]۔۔۔
    (یار کے حُسن و جمال کو اِک بیش‌بہا ریشمی کپڑے سے تشبیہ دی گئی ہے کہ جس نے بازار میں ظاہر ہو کر شاعر کو مُفلِس کر دیا ہے۔)
     
    آخری تدوین: ‏نومبر 23, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  13. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    گرچه ما را کُشت تیرِ او، ز بدحالی رَهانْد
    از نکویان در حقیقت هر چه می‌آید نکوست
    (محمد فضولی بغدادی)


    اگرچہ اُس [یارِ زیبا] کے تِیر نے ہم کو قتل کر دیا، [لیکن ہم کو] بدحالی سے رہائی و خلاصی دِلا دی۔۔۔ حقیقتاً، خُوبوں کی جانب سے جو بھی چیز آتی ہے خُوب [ہوتی] ہے۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  14. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    مرا گوید که مردُم را به افغان دردِ سر کم دِه
    نمی‌دانم چه حاصل می‌کند زین دردِ سر ناصِح
    (محمد فضولی بغدادی)


    [ناصِح] مجھ سے کہتا ہے کہ: "[اپنے] نالہ و فغاں سے مردُم کو دردِ سر کم دو"۔۔۔۔ میں نہیں جانتا کہ ناصِح کو اِس دردِ سر (تشویش و مشقّت) سے کیا حاصِل ہوتا ہے۔۔۔
     
    آخری تدوین: ‏نومبر 24, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  15. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    منقَبَت‌سرا شیعی شاعر «مولانا حسَن کاشی آمُلی» کی ایک بَیت میں «حسّان بن ثابِت» کا ذِکر:

    آن حسَن‌نامم که اندر مدحِ دامادِ نبی
    می‌کند بر طبعِ پاکم روحِ حسّان آفرین
    (مولانا حسَن کاشی آمُلی)


    مَیں وہ «حسَن» نامی [شاعر] ہوں کہ دامادِ نبی (حضرتِ علی) کی مدح کرتے وقت میری طبعِ پاک پر «حسّان بن ثابِت» کی رُوح آفرین کرتی ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    شعرِ حافظ در زمانِ آدم اندر باغِ خُلد
    دفترِ نسرین و گُل را زینتِ اَوراق بود
    (حافظ شیرازی)


    جس زمانے میں «آدم» [ہنوز] باغِ خُلد میں تھے، [تب بھی] وہاں «حافظ» کی شاعری نسرین و گُلِ سُرخ کے دفتر (ڈائری) کی زینتِ اَوراق تھی۔۔۔ (یعنی باغِ بہشت میں گُلِ نسرین و گُلِ سُرخ کے برگوں پر زیب و زینت کے لیے «حافظ» کی شاعری لِکھی ہوئی تھی۔)

    × «ورَق» (جمع: اَوراق) بُنیادی طور پر «برگِ درخت» کو کہتے تھے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  17. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    شُدم به زُهدِ قوی غرّه و ندانستم
    که زورِ عشق به عَجز افکَنَد توانا را
    (امیر علی‌شیر نوایی)


    میں [اپنے] زُہدِ قوی پر مغرور ہو گیا، اور میں نے نہ جانا کہ عِشق کا زور [تو] توانا کو [بھی] عاجِزی و ناتوانی میں گِرا دیتا ہے۔۔۔ (یعنی عشق کا زور قوی و توانا کو بھی عاجِز و ناتَواں کر دیتا ہے۔)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  18. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    انیسِ کُنجِ تنهایی کتاب است
    فُروغِ صُبحِ دانایی کتاب است
    (عبدالرحمٰن جامی)


    گوشۂ تنہائی کی انیس و ہم‌نشین کِتاب ہے۔۔۔ صُبحِ دانائی کی روشنائی و تابِش کِتاب ہے۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  19. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    روزی که مدارِ چرخ و افلاک نبود
    وآمیزشِ آب و آتش و خاک نبود
    بر یادِ تو مست بودم و باده‌پرست
    هر چند نشانِ باده و تاک نبود
    (عبدالرحمٰن جامی)


    اُس روز کہ جب چرخ و افلاک کی گردِش نہ تھی، اور آب و آتش و خاک کی آمیزِش نہ تھی، [تب بھی] مَیں تمہاری یاد میں مست اور بادہ‌پرست تھا۔۔۔ اگرچہ کہ شراب و تاک کا نام و نِشاں نہ تھا۔۔۔ (تاک = درختِ انگور)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  20. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,723
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    گُفتا: بِگیر زُلفم، گُفتم: ملامت آید
    قالَتْ: اَلَسْتَ تَدْرِی اَلعِشْقُ وَالْمَلامه
    (سَنایی غزنَوی)


    اُس نے کہا: "میری زُلف پکڑو"۔۔۔ میں نے کہا: "[مجھ پر] ملامت آئے گی"۔۔۔ اُس [معشوقہ] نے کہا: "آیا تم نہیں جانتے کہ عِشق اور ملامت [ہمیشہ ایک دوسرے کے ہم‌راہ ہوتے ہیں؟]"
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2

اس صفحے کی تشہیر