1. اردو محفل سالگرہ شانزدہم

    اردو محفل کی سولہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

احمدی اقلیت اور ہمارے علما کا رویہ

جاسم محمد نے 'اسلام اور عصر حاضر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 16, 2020

  1. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    سوال گندم جواب چنا۔
    جب قرآن کریم میں اللہ تعالیٰ نے ختم نبوت کا اعلان کر دیا تو یہودی عیسائی بشمول قادیانی سب کا رد ہوگیا۔ اس کے باوجود آپ یہودیوں اور عیسائیوں کی کیوں مثال دے رہے ہیں
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2020
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  2. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اگر آپ کی اس بات کو معیار کا پیمانہ بنایا جائے تو قرآن میں کہیں بھی کتے کے گوشت کو کھانے کی ممانعت نہیں تو کیا آپ کتے کو تناول فرمائیں گے؟ ماشاء اللہ علیک
    دلیل اس بات میں مانگی جاتی ہے جہاں پر کسی چیز کا فیصلہ کرنا مقصود ہو۔ جب قرآن میں اللہ تعالیٰ نے فیصلہ سنا دیا تو اسی فیصلے کے بارے میں دوبارہ دلیل مانگنا کس زمرے میں آتا ہے؟
    رہی بات کے آپ عقل استعمال کرتے ہیں تو قرآن میں اللہ کے سنائے گئے فیصلے کے خلاف دلیل مانگنے والوں کی ایسی عقل سے اللہ کی پناہ۔ آپ اپنی عقل اپنے پاس رکھئے گا اور میں ایسی عقل کو آپ کے پاس ہونے کی مبارک باد بھی نہیں دے سکتا کہ ایسی عقل آپ کو مبارک ہو۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • متفق متفق × 1
  3. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اگر کسی کو تعلیم دینی ہو تو سب سے پہلے اس کو قرآن میں ختم نبوت کا اللہ تعالیٰ کا اعلان دکھائیں گے۔ اس کے بعد آئین پاکستان کی دفعہ 295 بی سے متعارف کروائیں گے اور مفتی محمود اور مرزا ناصر قادیانی کے مابین کی گئی جرح دکھائیں گے دین کوئی مزاق نہیں ہوتا کہ ہر کوئی ایرا غیرا نتھو خیرا دلیل دلیل کھیل کر اس کے ساتھ کھلواڑ کرتا پھرے۔
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2020
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • متفق متفق × 1
  4. نوید خان

    نوید خان محفلین

    مراسلے:
    155
    اگر مراسلہ سمجھ نہ آئے تو اسے دو چار مرتبہ پڑھ لینا اچھی عادت ہوتی ہے اور جب تک نہ آئے تب تک تبصرہ کرنے سے گریز کرنا چاہیے۔ مذہب کی بنیاد جذبات اور تقدس پہ استوار کرنے سے مسئلہ حل نہیں ہو گا، جیسے ہی جذبات اور تقدس جاتے رہیں گے عمارت زمیں بوس ہوتی نظر آئے گی۔ عیسائی کہے گا جب "ہماری کتاب" نے یہ بات کر دی تو باقی سب رد ہو گیا، یہودی اپنی کتاب کے بارے یہی کہے گا؛ الغرض ہر مذہب کا پیروکار اپنی کتاب کو ریفرنس مان کر باقیوں پہ فتوے صادر کرے گا۔ اس طرح جیسے آپ نے یہ دلیل دی ہے کہ "جب قران کریم میں" اسی طرح "جب زبور میں"، "جب تورات میں"، الغرض "ہر مذہب کی کتاب میں" کو ریفرنس مان کر دلیل سے منہ چرا لیا جائے تو ہر شخص اپنی اپنی جگہ سچا ہے!
     
    • زبردست زبردست × 1
    • متفق متفق × 1
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  5. آورکزئی

    آورکزئی محفلین

    مراسلے:
    1,999
    جھنڈا:
    UnitedArabEmirates
    حیرت اس بات کا بھی ہے کہ جسکے بارے میں فرمایا گیا ہے ْ انا خاتم النبیین لا نبی بعدی ْ کے بعد بھی لوگوں پر حقیقت ظاہر کرنے کی ضرورت پڑرہی ہے۔۔۔
     
    • متفق متفق × 2
    • غمناک غمناک × 1
  6. آورکزئی

    آورکزئی محفلین

    مراسلے:
    1,999
    جھنڈا:
    UnitedArabEmirates
    یہ میرے پوسٹ کا جواب ہے ۔۔۔۔؟؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  7. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    396
    حضرات! آپ کے اصول پر اگر مفتی محمود صاحب کے مناظرے کے سوالات کو پرکھا جائے تو آپ کے نظریہ کے مطابق تو مفتی صاحب کا مناظرہ بھی خدانخواستہ متنازعہ ہو جائے گا

    مفتی صاحب کے سوالات ملاحظہ کیجئے

    مناظرہ مفتی محمود صاحب ومرزا طاہر قادیانی - صُفَّہ اسلامک ریسرچ سنٹر

    ذرا غور فرمائیے کہ پہلے ہی سوال کے جواب میں جب مرزا ناصر نے مرزا قادیانی کو امتی نبی (معاذ اللہ) قرار دے دیا تھا تو مفتی صاحب نے وحی کے متعلق اور صحابہ اکرام رضی اللہ عنہم کے متعلق سوالات کیوں کیے؟؟؟؟؟ پہلے ہی سوال پر معاملہ ختم ہو جانا چاہیے تھا!!! امتی نبی ماننے کے بعد تو مزید سوالات کرنے کی گنجائش ہی نہیں نکلتی ہے نا؟؟؟ لیکن حجت تمام کرنے کے لئے انھوں نے مزید سولات کیے۔ اس بارے میں کیا فرمائیں گے آپ؟؟؟ کیا آپ مفتی صاحب کو بھی اسلام سے خارج قرار دیں گے؟؟؟
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 3, 2020
    • زبردست زبردست × 3
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  8. وجی

    وجی لائبریرین

    مراسلے:
    26,003
    موڈ:
    Daring
    سوال تو یہ ہے کہ پاکستان کی قومی مجلس شورٰی میں مفتی محمود نے کیوں قادیانیوں کی جرح کی ؟؟ انہوں نے بھی قادیانیوں کی بات سنی ہوگی اپنی کی ہوگی
    وہ کرسکتے ہیں کوئی دوسرا نہیں؟؟
     
    • زبردست زبردست × 1
    • متفق متفق × 1
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  9. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    396
    انا للہ و انا الیہ راجعون!
    دوسروں پر انگلی اٹھانے سے پہلے اپنے علم میں اضافہ کرنے کی فکر کیجئے اور کوشش فرمائیے!!!

    قرآن میں حلال و حرام کے بارے میں واضح فرمان آیا ہے

    سورة المآئدہ - آیت 1

    يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا أَوْفُوا بِالْعُقُودِ ۚ أُحِلَّتْ لَكُم بَهِيمَةُ الْأَنْعَامِ إِلَّا مَا يُتْلَىٰ عَلَيْكُمْ غَيْرَ مُحِلِّي الصَّيْدِ وَأَنتُمْ حُرُمٌ ۗ إِنَّ اللَّهَ يَحْكُمُ مَا يُرِيدُ


    اے ایمان والو ! معاہدوں کو پورا کرو۔ تمہارے لیے وہ چوپائے حلال کردیے گئے ہیں جو مویشیوں میں داخل ( یا ان کے مشابہ) ہوں۔ (١) سوائے ان کے جن کے بارے میں تمہیں پڑھ کر سنایا جائے گا (٢) بشرطیکہ جب تم احرام کی حالت میں ہو اس وقت شکار کو حلال نہ سمجھو۔ (٣) اللہ جس چیز کا ارادہ کرتا ہے اس کا حکم دیتا ہے (٤)

    (ترجمہ ترجمان القرآن۔ مولاناابوالکلام آزاد)

    تفسیر تیسیر الرحمن لبیان القرآن ۔ محمد لقمان سلفی صاحب

    بہیمۃ سے مراد چوپائے ہیں اور انعام نعم کی جمع ہے، نعم اونٹ، گائے اور بکری کو کہتے ہیں، ابن عباس (رض) اور حسب بصری کا یہ قول ہے یعنی تمہارے لیے ان جانوروں کا گوشت کھانا حلال کردیا گیا ہے۔ خطرناک اور شکار کرنے والے جانور مثلاً شیر اور چیتا اور ناخن والے جانور انعام میں داخل نہیں ہیں۔ جن دیگر جانوروں کی خطرناک اور شکار کرنے والے جانور مثلا شیر اور چیتا، اور ناخن والے جانور انعام میں داخل نہیں ہیں۔ جن دیگر جانوروں کی حلت قرآن و سنت کے صریح نصوص سے ثابت ہے ان کا کھانا بھی حلال ہے، مثلا ہر نی اور جنگلی گدھا وغیرہ۔ اللہ نے سورۃ انعام آیت 145 میں فرمایا ہے قل لا اجد فی ما اوحی الی محرما علی طاعم یطعمہ الا ان یکون میتۃ، آپ کہہ دیجئے کہ جو کتاب مجھے بذریعہ وحی دی گئی ہے، اس میں کسی کھانے والے کے لیے کوئی چیز حرام نہیں پاتا ہوں سوائے اس ککے کہ کوئی مردار جانور ہو، اور نبی کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے فرمایا ہے، یحرم کل ذی ناب من السبع و مخلب من الطیر (مسلم، احمد، ترمذی)۔ ہر دانت والا درندہ اور ہر چنگل والی چڑیا حرام ہے۔ اس سے معلوم ہوا کہ ان کے علاوہ جانوروں کا کھانا حلال ہے بعض صحابہ کرام نے اسی آیت سے استدلال کرتے ہوئے مذبوحہ جانور کے پیٹ کے بچے کا بھی کھانا حلال قرار دیا ہے۔ 3۔ یعنی اس حلت سے وہ جانور مستثنی ہیں جن کے کھانے کی حرمت قرآن یا سنت میں بیان کردی گئی ہے۔ جیسے سورۃ مائدہ کی آیت 3 حرمت علیکم المیتۃ الایۃ میں جو کچھ بیان ہوا ہے، یا نبی کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کا وہ قول جو ابھی گذرا ہے کہ ہر ناخن والے جانور اور ہر پنجہ والی چڑیا کا کھانا حرام ہے۔ آیت کے اس حصہ سے یہ بھی معلوم ہوا کہ رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کی ہر سنت کتاب اللہ میں داخل ہے۔ اس لیے کہ رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے جن جانوروں اور چڑیوں کا کھانا حرام قرار دیا ہے، وہ سب باتفاق علماء الا ما یتلی علیکم میں داخل ہیں۔ اس کی ایک دلیل وہ مزدور والی حدیث بھی ہے جس کے باپ نے آ کر رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) سے کہا کہ یارسول اللہ ! میرا یہ لڑکا فلاں کے یہاں مزدوری کرتا تھا، اور اس کی بیوی کے ساتھ زنا کیا ہے، اس بارے میں فیصلہ کردیجئے، تو آپ نے فرمایا : لاقضین بینکما بکتاب اللہ کہ میں تم دونوں کے درمیان کتاب اللہ کے مطابق فیصلہ کروں گا، حالانکہ رجم قرآن کریم میں منصوص نہیں ہے۔ اس کے بعد اللہ نے فرمایا غیر محلی الصید، یعنی حالت احرام میں شکار کرنا حرام ہے، اور شکار کے علاوہ جانور حرام اور غیر احرام دونوں حالتوں میں حلال ہوگا، اس کے بعد فرمایا کہ اللہ جو چاہتا ہے حکم دیتا ہے، کیونکہ وہ مالک کل ہے اسی لیے اس نے زمانہ جاہلیت میں عربوں میں رائج احکام کے خلاف حکم دیا ہے۔

    سورة المآئدہ - آیت 1

    نعم کے علاوہ جانوروں کا گوشت حرام قرار دیا گیا ہے۔ اس آیت سے واضح ہے کہ کتا اور دیگر شکار کرنے والے خطرناک جانور حرام کیے گئے ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
    • مضحکہ خیز مضحکہ خیز × 1
  10. نوید خان

    نوید خان محفلین

    مراسلے:
    155
    اس کا جواب ویسے تو تفصیلی بنتا ہے لیکن میں فقط ایک ہی دلیل سے معاملے کو واضح کرنے کی کوشش کروں گا۔ قران میں یقیناً دنیا میں ہونے والے ہر ہر کام کے بارے میں نہیں بتایا کہ آیا وہ کرنا چاہیے یا نہیں یعنی ٹرانسپورٹ پہ سفر کرنا حلال ہے یا حرام، ٹی وی دیکھنا حلال ہے یا حرام، کسی بھی ایسی چیز کو کھانا حلال ہے یا حرام جس کا ذکر قرآن میں نہیں ہے تو اس کا فیصلہ کرنے کا حق صرف اور صرف انسان اور معاشرے (امرھم شوری بینھم) کو ہے۔ اس معاشرے کے انسان پھر طبعی، طبی، حیاتیاتی، جغرافیائی وغیرہ وغیرہ پہلوؤں کو مدنظر رکھتے ہوئے خود کریں گے کہ آیا یہ کام کرنا چاہیے یا نہیں، اس کے مثبت اثرات کیا ہونگے، منفی اثرات کیا ہونگے، حدود کیا ہونگی، کیا کھانا چاہیے اور کیا نہیں کھانا چاہیے، یہ بالکل ایک تقافتی اور معاشرتی معاملہ بن کر رہ جائے گا جو ہر ثقافت اور معاشرت کے حساب سے متغیر ہو گا!
    "جب قران نے" ایک چیز کا فیصلہ سنا دیا تو پھر اس کا مطلب ہے دلیل مانگنے میں کوئی عار نہیں کیونکہ قران تو سچا ہے وہ شخص لازمی جھوٹا ہو گا۔ پریشانی تو اس شخص کو ہونی چاہیے جو دعویٰ کر رہا ہے کیونکہ وہ "جانتے ہوئے بھی کہ وہ جھوٹا ہے" پھر بھی دعویٰ کر رہا ہے اور دلیل مانگنے والا جانتے ہوئے بھی کہ "وہ سچا ہے" دلیل مانگ کر اس جھوٹے شخص کی حقیقت کو آشکار کر رہا ہے۔ اگر حق "حق" ہے تو پھر حق کو تو کوئی مسئلہ نہیں ہونا چاہیے!
    دلیل فیصلہ کرنے کے لیے نہیں بلکہ دعویٰ کرنے والے کی دعوے کی حقیقت کی پڑتال کرنے کے لیے مانگی جاتی ہے جس کے بعد فیصلہ کیا جاتا ہے کہ آیا اس کا دعویٰ صحیح ہے یا نہیں اور جب ہمیں اس کی حقیقت پہلے سے پتہ ہے تو پھر دلیل مانگ کر اس کے جھوٹے دعوے کو سب کے سامنے لانے میں کیا برائی ہے۔ اگر ہر مسلمان بشمول آپ کے کا یہ ایمان ہے کہ قران سچا ہے تو پھر یہ سمجھ سے بالاتر ہے کہ خود کو مسلمان کہلانے والے کیوں بضد ہیں کہ دلیل نہیں مانگنی چاہیے اور دلیل مانگنے والا کافر ہے، دلیل مانگنے سے حق تو حق ہی رہے گا نہ کہ بدل جائے گا!
    جی الحمدللہ!
    دیگر مذاہب کے لوگ بھی اپنے خداؤں کی کہی گئی باتوں کے بارے میں یہی کہتے ہیں۔ آپ کا ایمان ان سے کچھ الگ محسوس نہیں ہوتا!
     
    • زبردست زبردست × 3
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  11. نوید خان

    نوید خان محفلین

    مراسلے:
    155
    میرے خیال سے آپ نے کسی اور مراسلے کا اقتباس لینا چاہا ہے!
     
    • زبردست زبردست × 1
  12. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,902
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    خود ہی بتا رہے ہیں کہ مفتی محمود نے جرح کی تھی، اور خود ہی یہ فیصلہ بھی سنا رہے ہیں کہ جرح کی نیت سے بھی دلیل مانگنے والا کافر ہوتا ہے۔ یعنی مفتی محمود آپ کے نزدیک پھر پکے پکے کافر ہوئے؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 3
  13. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,902
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    یعنی آپ یہ بھی مانتے ہیں کہ جھوٹے سے دلیل مانگنے کا یہ اثر ہوتا ہے کہ وہ اپنے دعوے کا دفاع کرنے میں ناکام رہتا ہے اور اس کا جھوٹ ان پر بھی عیاں ہو جاتا ہے جو اسلام کو پہلے سے نہیں مانتے۔ یعنی یہ عمل حتمی طور پر اسلام کی تبلیغ کا سبب بنتا ہے۔ پھر آپ کو اس سے اتنا مسئلہ کیوں ہے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  14. محمد عبدالرؤوف

    محمد عبدالرؤوف لائبریرین

    مراسلے:
    4,225
    حضرت عیسیٰ علیہ السلام نے اپنے حواریوں سے ایک بار فرمایا تھا کہ مجھے تم سے بہت باتیں کرنا تھیں مگر تم ان باتوں کو سمجھنے کی صلاحیت نہیں رکھتے جب آخری نبی حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم تشریف لائیں گے تو تمہیں سب بتائیں گے
    اب ذرا آپ بتائیں جب انسان کی فہم اس نہج تک پہنچی ہی نہیں تھی انبیاء کرام علیہم السلام انسان کو کیا سمجھاتے، چاہے آپ پہلی دوسری کلاس کے بچے کو کوئی پی ایچ ڈی استاد فراہم کر بھی دیں تو بھلا وہ کیا پڑھائے گا، پڑھائے گا تو وہی جو بچہ سمجھ سکے۔ آپ یقیناً انسان کی سوچ کے ارتقاء پر یقین تو رکھتے ہوں گے پھر جب اللہ تعالٰی نے اپنے آخری پیغمبر پر اتمام کیا یعنی علم کی معراج عطاء کر دی پھر آپ کیسے اللہ تعالیٰ کے پرانے احکامات اور نئے اور آخری پیغام کے ساتھ کیسے برابر گردان سکتے ہیں۔ یا تو آپ سمجھنا ہی نہیں چاہتے یا پھر آپ کا ذہن ارتقائی عوامل سے عاری رہا اور اب اللہ کے آخری پیغام کو سمجھنے کی صلاحیت نہیں رکھتا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  15. وجی

    وجی لائبریرین

    مراسلے:
    26,003
    موڈ:
    Daring
    جناب پہلے کہا تھا سمجھ نہیں آئے گا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • مضحکہ خیز مضحکہ خیز × 1
  16. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    مفتی محمود کے مناظرے کو متنازعہ بناکر بھی کوئی مائی کا لعل 295 بی کو ختم کرنےکی جرات نہیں کر سکتا ہے۔ علاوہ ازیں مفتی محمود کے مناظرے کو متنازعہ کرنےکے باوجود قرآن حکیم میں اللہ کا ختم نبوت بارے فیصلے کو کیسے رد کریں گے۔
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 4, 2020
    • متفق متفق × 1
    • غمناک غمناک × 1
  17. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed


    اسورۃ احزاب کی آیت 40 میں اللہ کا ختم نبوت بارے اعلان واضح ہے۔
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏دسمبر 20, 2020
    • متفق متفق × 1
    • غمناک غمناک × 1
  18. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    سب سے پہلے تو اس پر فیصلہ اللہ تبارک و تعالیٰ نے خود سنایا ہے۔ پھر اسمبلی میں قادیانیوں کو موقع دیا گیا اور قانونی تقاضے پورے کئے گئے اور پوری دنیا کی واحد اسلامی ریاست نے ان کو کافر قرار دیا اور فیصلہ 295 بی کی شکل میں آیا میں ان فیصلوں کی یادداشت کروارہا ہوں۔ اور آپ سے بھی درخواست ہے کہ سورۃ احزاب کی آیت 40 کا ترجمہ و تفسیر پڑھ لیں اس کے بعد آئین کے آرٹیکل 295 بی کا مطالعہ بھی کر لیں۔
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2020
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • متفق متفق × 1
  19. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,388
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بلکل صرف وہی کر سکتے تھے کیوں کہ ریاست نے انہی کے ذریعے قادیانی ملعونوں کو صفائی کا موقع دیا اور 13 دن مسلسل موقع ہی دیا۔ لیکن جب ایک دعویدار خلیفہ ہی اپنے جھوٹے مذہب کا دفاع نہ کر سکا تو اب اس میں تا قیامت دلیل دلیل کھیلنے کا کوئی فائدہ نہیں۔
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2020
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • متفق متفق × 1
  20. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,902
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    میں آپ کے سوال کا جواب تو دے دوں گا۔ لیکن پہلے ایک بات واضح کریں۔ کیا "آئیں بائیں شائیں" جیسے تحقیری کلمات کے ساتھ یہ سوال پوچھنے کا مقصد وہی ہے جو عام طور پر ایسے طنزیہ سوال کا ہوا کرتا ہے؟ یعنی مخاطب کو اشاروں کنایوں میں قادیانی جتانا؟

    نیز یہ آئیں بائیں شائیں کیسے ہو گئی؟ کیا ہمارا اختلاف آپ سے ختم نبوت کے معاملے پر ہوا تھا یا آپ لوگوں کے اس دعوے پر جو آپ نے کیا کہ جھوٹے سے دلیل مانگنے والا بھی کافر ہے بے شک وہ دلیل اس کا جھوٹ سامنے لانے کی نیت سے ہی ہو؟ حیرت انگیز طور پر آپ کے پسندیدہ علماء کو اس اصول سے استثنیٰ بھی حاصل ہے اور وہ اس سے یکسر الٹ عمل کر کے قادیانی بھی نہیں ہوتے کہ انہیں سورۃ احزاب کی آیت 40 کے بارے میں لوگوں کو اپنے ایمان کی وضاحتیں دینی پڑیں۔
     
    • زبردست زبردست × 1
    • متفق متفق × 1

اس صفحے کی تشہیر