آنے لگا ہے راس غمِ عاشقی مجھے

عاطف ملک نے 'آپ کی شاعری (پابندِ بحور شاعری)' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اگست 26, 2019

  1. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,240
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    آنے لگا ہے راس غمِ عاشقی مجھے
    دینے لگی ہے لطف یہ دیوانگی مجھے

    وہ دے رہا تھا مجھ کو تسلی کہ خوش ہے وہ
    اور لگ رہی تھی آنکھ میں اس کی نمی مجھے

    گو ان کی مثل ہونے کا دعوٰی نہیں رہا
    کہتے ہیں پھر بھی عکس انھی کا سبھی مجھے

    مختار ہوں تو کیسے ہوں؟ عاجز ہوں میں تو کیوں؟
    الجھن تمام عمر رہی بس یہی مجھے

    خوشیاں ہیں، رونقیں ہیں، بہاریں ہیں چار سو
    اور آ رہا ہے یاد برابر کوئی مجھے

    آیا نہ راس مجھ کو کسی دوسرے کا قرب
    محسوس ہو رہی ہے تمھاری کمی مجھے

    رکھی جو تُو نے دل میں مرے جستجو کی آگ
    در در تری تلاش میں وہ لے گئی مجھے

    پہلے تو جرمِ عشق میں کھینچیں گے دار پر
    اور اس کے بعد لوگ کہیں گے ولی مجھے

    اک شمع تیرے دل میں فروزاں ہے عشق کی
    عاطفؔ بتا رہی ہے تری شاعری مجھے

    عاطفؔ ملک
    اگست ۲۰۱۹
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏اکتوبر 18, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 1
  2. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی لائبریرین

    مراسلے:
    18,770
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    بہت عمدہ زبردست
    واہ واہ ،
    کیا کہنے ہیں ،
    شاندار غزل عاطف بھیا ۔
     
  3. محمد تابش صدیقی

    محمد تابش صدیقی منتظم

    مراسلے:
    25,382
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    بہت خوب
     
  4. فرحان محمد خان

    فرحان محمد خان محفلین

    مراسلے:
    2,144
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheeky
    واہ واہ واہ
    اللہ کرے زورِ قلم اور زیادہ
     
  5. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,240
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    بہت شکریہ عدنان بھائی
    متشکرم
    شکریہ فرحان بھیا:)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  6. ظہیراحمدظہیر

    ظہیراحمدظہیر محفلین

    مراسلے:
    3,353
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    بہت خوب عاطف! کیا خوب غزل ہے! کئی اچھے اشعار ہیں!
    وہ دے رہا تھا مجھ کو تسلی کہ "خوش ہوں میں"
    اور لگ رہی تھی آنکھ میں اس کی نمی مجھے
    مندرجہ بالا شعر کے بارے میں کچھ کہنا چاہوں گا۔ چونکہ مصرع اول آپ نے لفظ "کہ" استعمال کیا ہے اس لئے اس کے بعد واوین کی ضرورت نہیں ۔ اب یہ مصرع یوں ہونا چاہئے:
    وہ دے رہا تھا مجھ کو تسلی کہ خوش ہے وہ
    اور لگ رہی تھی آنکھ میں اس کی نمی مجھے

    ایسا کرنے سے واوین والے مصرع کی تعقید دور ہوگئی۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  7. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,240
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    حوصلہ افزائی کیلیے بہت ممنون ہوں جناب:)
    جی، بہتر۔
    تصیح کر لیتا ہوں۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  8. یاسر شاہ

    یاسر شاہ محفلین

    مراسلے:
    863
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    ما شاء الله خوب غزل ہے عاطف بھائی -:)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  9. عاطف ملک

    عاطف ملک محفلین

    مراسلے:
    1,240
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Innocent
    آپ کا حسنِ نظر ہے یاسر بھائی:)
    شکریہ
     

اس صفحے کی تشہیر