محمد خلیل الرحمان

  1. زبیر صدیقی

    غزل برائے اصلاح - اور کوئی غم نہیں

    السلام علیکم صاحبان و اساتذہ۔ ایک غزل پیشِ عرض ہے۔ کرونا کی وبا کی وجہ سے سفر کرنے سے قاصر ہوں، اور ایک مدت ہو گئی اپنے پیاروں سے ملے ہوئے، اپنے شہر (کراچی) گئے ہوئے۔ انہی جذبات کے اظہار کی کوشش کی ہے۔ برائے مہربانی اصلاح فرمائیں۔ (علم ہے کہ استاد الف عین صاحب اسکرین دیکھنے سے قاصر ہیں، مگر ان...
  2. سیما علی

    دعا ہمارے ہر دلعزیز شمشاد بھیاکی صحت کے لیے دعا

    ہمارے ہر دلعزیز شمشاد بھیا کے لیے ڈھیروں دعائیں ،ہم سمجھے وہ پی ایس ایل میں مصروف ہیں ۔ اور اُنکی طبعیت ناساز تھی ۔اب بہتر ہیں ۔ہماری ڈھیر ساری دعایں ۔۔۔ مالک ہمارے بھیا کو سلامت رکھے شاد و آباد رکھے ۔اور ہر مشکل اور بیماری سے محفوظ رکھے آمین الہی آمین ۔۔
  3. زبیر صدیقی

    غزل برائے اصلاح - ہوئے مصروفِ کار، آخرکار

    السلام علیکم صاحبان۔ غیر حاضری کی معذرت۔ اولاً چین میں یہ ویبسائٹ کافی دیر سے لوڈ ہوتی ہے اور پچھلے دنوں بہت ہی سست تھی۔ دوئم یہ کہ دفتری مصروفیات بڑھ گئیں ہیں جس نے ارتکازِ آمد پہ پہرے بٹھا دیے ہیں۔ بلکہ تازہ درج ذیل غزل بھی اسی الجھن کو بیان کر رہی ہے۔ خیر اِنَّ مع العسر یسراً کے حساب سے حل...
  4. امین شارق

    نئی غزل برائے تبصرہ و اصلاح شاعر امین شارؔق

    محترم اساتذہ کرام جناب الف عین، سید عاطف علی محمد خلیل الرحمٰن محمد احسن سمیع: راحل ایسے تمہاری یاد کے جالے نہیں جاتے جیسے قمر کو چھوڑکر ہالے نہیں جاتے دل سے تیری یادوں کے اجالے نہیں جاتے ماضی کے یہ غم مجھ سے سنبھالے نہیں جاتے کیا دور چل رہا ہے کہ اخلاص ہی نہیں اولاد سے ماں باپ بھی پالے نہیں...
  5. Muhammad Ishfaq

    غزل برائے اصلاح

    محمد خلیل الرحمن الف عین اور دیگر اساتذہ اکرام مفاعیل فاعلات مفاعیل فاعلن غزل کیا بتاؤں حال کیسا ہمارا ہے آج کل مخالف ہوا جہان یہ سارا ہے آج کل گریزاں ہے منزل بھی ہے دشوار رستہ بھی کہ گردش میں میرا کوئی ستارا ہے آج کل بھری بزم میں پشیماں نہ ہوتا میں کس...
  6. محمد ابراہیم کوثر

    اشعار کی اصلاح

    میں نے کتبہ لے لیا ہے اب کفن درکار ہے زندگی کی نظم میں مجھ کو سخن درکار ہے ہم سفر کی روح سے ہموار ہوں راہیں تری کون احمق تجھ سے سے گویا ہے بدن درکار ہے تھی جفا کش طبقے کی تعطیل لیکن وہ وہاں کام پر مجبور تھے کہ آمدن درکار ہے تیری باتوں سے نکھار آتا ہے خدو خال میں جس طرح شعروں میں ندرت کو خبن...
  7. زبیر صدیقی

    برائے اصلاح : دکھائی دے

    السلام علیکم صاحبان ؛ اساتذہ؛ ایک اور غزل کی جسارت کر رہا ہوں۔ ذرا راہنمائی فرمائیں۔ الف عین محمد خلیل الرحمٰن سید عاطف علی ہر کچھ نہیں اچھا ہے جو اچھا دکھائی دے کائی ہمیشہ دور سے سبزہ دکھائی دے میں تب کہوں گا "دیکھ رہا ہوں میں آئینہ" خامی بھی میری عکس کے ہمراہ دکھائی دے چہرے پہ چہرہ...
  8. زبیر صدیقی

    غزل برائے اصلاح - بدلا جا رہا ہے

    تمام صاحبان کی خدمت میں تسلیمات۔ ایک اور غزل پیشِ خدمت ہے۔ برائے مہربانی اپنی قیمتی آراء اور مشوروں سے احقر کو نوازیں۔ زمانہ رنگ بدلا جا رہا ہے فسانہ ڈھنگ بدلا جا رہا ہے میں تنگ ہو کر نہ بدلا تو بلآخر وہ ہو کر دنگ، بدلا جا رہا ہے خرد کے بعد، دھڑکن سے بغاوت یہ دل اب جنگ بدلا جا رہا ہے خدا...
  9. ذیشان لاشاری

    برائے اصلاح

    یہ قد و قامت یہ خدوخال اور گیسوئے تابدار دی ہے تمھاری صورت میں گویا قدرت نے اک قیامت اتار دی ہے گھنی سیاہی جو رات کی ہے تمھاری زلفوں کی ہے عنایت تمھارے گالوں نے چاند تاروں کو روشنی کچھ ادھار دی ہے تمھارے ہونٹوں کی دلکشی جیسی بات اس میں ذرا نہیں ہے اگرچہ قدرت نے نازکی تو کلی کو بھی بے شمار دی...
  10. تنظیم اختر

    غزل برائے اصلاح

    غزل برائے اصلاح گر تو بسا ہوا مرے اندر، نہیں ہوتا اللہ قسم موت کا، پھر ڈر نہیں ہوتا بہتے ہیں اگر اشک تو بہنے سے نہ روکو دو چار سے یہ خالی سمندر نہیں ہوتا چھوڑ کر جاتا نہیں گر تو مرا مکاں آباد رہتا یہ کبھی کھنڈر نہیں ہوتا ملتی ہمیں گر دیس میں دو وقت کی روٹی پردیس میں مرنا یوں مقدر نہیں ہوتا...
  11. بافقیہ

    آپ کے پسندیدہ شاعر

    ہر شخص اپنی فطرت، مزاج ، ذوق اور جذبات و احساسات کے باعث اپنا انتخاب رکھتا ہے۔ اور اسے اپنے انتخاب کا مکمل حق بھی ہے۔ کسی میں درد و کرب اور مصیبت و غم کا پہلو غالب رہتا ہے، تو کوئی فرحت و انبساط اور خوشی و مسرت کے مضامین میں دلچسپی رکھتا ہے۔ کوئی امت کا درد دل میں لئے فکر امت میں گھلتا ہے، اور...
  12. اسماء آرزو

    برائے اصلاح

    اسلام وعلیکم! میں ردیف قافیہ سے زیادہ نہیں جانتی تھی شاعری کو اب کچھ باتیں سیکھی ہیں بلکہ سیکھنا شروع کیا ہے یہ پہلی کوشش ہے۔۔۔۔۔ آپکی اصلاح کی خواستگار ہوں۔۔۔۔ تمہیں تو لگتی بادِ بہار تھی میں پھر یہ کب جانا ہے تم نے خار تھی میں اب کہ کس طرح کی تار تار تھی میں یہ کیا اپنے ہی آر پار تھی میں...
  13. محمد خلیل الرحمٰن

    یو ٹرن

    یو ٹرن محمد خلیل الرحمٰن سو دن ہوئے ہیں کچھ تو بھلا کر دِکھاییے یو ٹرن کی بھی ایک وزارت بنائیے اتنے بہت سے ٹرن لیے ہیں جناب نے جی چاہتا ہے اُنکی کتاب اِک بنائیے تحریک جو چلائی تھی انصاف کے لیے یو ٹرن ایک اُس کی بھی خاطر بنائیے جتنے بھی اعتراض اٹھائے تھے آپ نے اب وقت ہے کہ اُن کو ذرا بھول...
  14. محمد خلیل الرحمٰن

    وہ جسے چاہا گیا:: ایک نئے انداز میں

    وہ جسے چاہا گیا:: الطاف فاطمہ کا افسانہ ایک نئے انداز میں از محمد خلیل الرحمٰن ’’خالص سونے کی ڈلی۔‘‘ ’’اُس نے اپنے نام کے یہی تو معنی بتائے تھے۔‘‘ جم نکو لس نے ٹیلی ویژن پر تھرکتی ہوئی صورتوں کی طرف سے منہ پھیر کر سوچا۔ ’’پر وہ نام تھا کیا؟‘‘یہ اس کے ذہن سے اُتر گیا تھا، اور ذہن سے تو...
  15. محمد طلحہ گوہر چشتی

    بدل دو زندگی۔۔۔۔ مصنف محمد طلحہ گوہرؔچشتی۔۔۔۔ کتاب کا مطالعہ ضرور فرمائیے

    الحمد اللہ بفضلِ خدا میری پہلی تصنیف ۝ بدل دو زندگی۝ کی انٹرنیٹ پر اشاعت ہو چکی ہے۔ مندرجہ ذیل رابطوں پر اس کتاب کو پڑھا اور ڈاونلوڈ کیا جا سکتا ہے۔ بزم اردو لائبریری بدل دو، زندگی ۔۔۔ محمد طلحہ گوہرؔ - بزم اردو لائبریری مفت کتب پر مفت اردو کتابیں: بدل دو، زندگی ۔۔۔ محمد طلحہ گوہرؔ
  16. محمد طلحہ گوہر چشتی

    اِصلاح درکار ہے

    ‏فاعلاتن مفاعلن فعلن گر میں ان سے ملا نہیں ہوتا عشق کا سانحہ نہیں ہوتا حادثے تو بہت ہوئے لیکن جانے کیوں تو مرا نہیں ہوتا بد گماں مجھ سے کر گیا کوئی ورنہ وہ تو خفا نہیں ہوتا سوز ہم کو ملے مگر دائم گاہے گاہے بُکا نہیں ہوتا چاہتیں ہیں کہ جو بدلتی ہیں عشق تو بارہا نہیں ہوتا ان کے دربار کا جو...
  17. محمد طلحہ گوہر چشتی

    برائے اصلاح

    برگ و بر ہیں دیکھ رکھے، گل ستاں دیکھا ہوا چاند، سورج، کہکشائیں، آسماں دیکھا ہوا دیکھا ہے جب سے تمہیں، ہوش و خرد سب کھو گیا زُعم تھا مجھ کو کہ ہے سارا، جہاں دیکھا ہوا تم مجھے حیران بھی کر سکتے ہو سوچا نہ تھا آنکھ نے چہرہ حسیں تھا ہی کہاں دیکھا ہوا میں نے دیکھی دوستی کے نام پر دھوکا دھڑی عاشقی کے...
  18. ھشام نجم

    1973 میں بذریعہ سڑک راول پنڈی سے مکہ مکرمہ کے سفر کی ایک منفرد داستان۔ آن لائن فارمیٹ میں۔

    معزز ممبران، میرے خاندان کے ایک بزرگ نے 1973 میں حج کا سفر بذریعہ سڑک طے کیا، اور اس دو ماہ کے سفر کی داستان انہوں نے خود تحریر بھی کی۔ حال ہی میں انہوں نے میری ذمہ داری لگائی کہ میں اس سفرنامہ کو کتابی شکل دوں اور شائع کرواں۔ لیکن میں نے انہیں مشورہ دیا کہ وہ اپنے سفر نامے کو آن لائن شائع...
  19. محمد خلیل الرحمٰن

    شاعروں کے مسائل پر ایک غزل

    شاعروں کے مسائل پر ایک غزل محمد خلیل الرحمٰن مرنے کے بعد ہم کو بھی رُسوا نہ کیجیو! کہیو غزل نہ کوئی ہماری زمین میں اپنی زمین ہم نے رجسٹر کرائی تھی احباب اُس کو لے گئے ایران و چین میں یاروں نے قافیے بھی اچھوتے ہی گھڑ لیے اور ہم پھنسے ہوئے ہیں اسی قاف و شین میں سُسرا! غزل ہماری ہمیں کو سُنا...
  20. محمد خلیل الرحمٰن

    چھوٹا سا مگرمچھ

    چھوٹا سا مگر مچھ چھوٹا سا مگر مچھ کیسے اپنی دُم کو ہردم سنبھال رکھتا ہے گنگا جل میں دھوکر کیسے چمکیلی اپنی وہ کھال رکھتا ہے کیسی میٹھی میٹھی اس کی مسکراہٹ کیسے ہیں تیز اس کے دانت چھوٹی چھوٹی مچھلیوں کو دھیرے دھیرے کھاتا ہے کتنا خیال رکھتا ہے محمد خلیل الرحمٰن How doth the little crocodile...
Top