نوشی گیلانی ہم نے سوچ رکھا ہے۔۔۔۔۔نوشی گیلانی

سیفی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ستمبر 13, 2005

  1. سیفی

    سیفی محفلین

    مراسلے:
    634
    ہم نے سوچ رکھا ہے۔۔۔۔۔نوشی گیلان

    ھم نے سوچ رکھا ہے!
    چاہے دل کی ہر خواہش
    زندگی کی آنکھوں سے اشک بن کے بہ جائے
    چاہے اب مکینوں پر گھر کی ساری دیواریں
    چھت سمیت گر جایں
    اور بے مقدر ھم
    اس بدن کے ملبے میں خود ہی کیوں نہ دب جایں
    تم سے کچھ نہیں کہنا

    کیسی نیند تھی اپنی کیسے خواب تھے اپنے
    اور اب گلابوں پر
    نیند والی آنکھوں پر
    نرم خو سے خوابوں پر

    کیوں عذاب ٹوٹے ہیں
    تم سے کچھ نہیں کہنا

    گھر گیے ہیں راتوں میں
    بے لباس باتوں میں
    اس طرح کی راتوں میں
    کب چراغ جلتے ھیں کب عذاب ٹلتے ہیں
    اب تو ان عذابوں سے بچ کےبھی نکلنے کا راستہ نہیں جاناں!
    جس طرح تمہیں سچ کے لازوال لمحوں سے واسطہ نہیں جاناں!
    ھم نے سوچ رکھا ہےتم سے کچھ نہیں کہنا
     
    • زبردست زبردست × 2
  2. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,725
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    اللہ کیا نظم ہے - میرا تو دل ہل گیا سیفی صاحب! نوشی گیلانی، پروین شاکر سے ہزار درجہ بہتر شاعرہ ہے - (پروین شاکر کے مدّاحوں سے معزرت کے ساتھ)
     
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  3. عمر سیف

    عمر سیف محفلین

    مراسلے:
    36,612
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Where
    بہت خوب ۔۔۔۔
     

اس صفحے کی تشہیر