1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $453.00
    اعلان ختم کریں

گاؤں،شہر

جاسمن نے 'اشعار اور گانوں کے کھیل' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 24, 2018

ٹیگ:
  1. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ”چشمِ یعقوب” کرچکی ثابت
    ”ہجر ”بینائی چھین لیتا ھے

    گاؤں میں جھوٹ کےنہیں پاؤں
    “شہر ”سچائی چھین لیتا ھے

    سیدہ ربابؔ عابدی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 2
  2. محمد تابش صدیقی

    محمد تابش صدیقی منتظم

    مراسلے:
    23,927
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    وہ گاؤں کا اک غریب دہقاں سڑک کے بننے پہ کیوں خفا تھا
    جو اس کے بچے شہر کو جا کر کبھی نہ لوٹے تو لوگ سمجھے!
    احمد سلمان
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 1
  3. حمیرا عدنان

    حمیرا عدنان مدیر

    مراسلے:
    6,676
    جھنڈا:
    Kuwait
    موڈ:
    Angelic
    جب میں اس کے گاؤں سے باہر نکلا تھا
    ہر رستے نے میرا رستہ روکا تھا

    اسلم کولسری
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  4. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ہوئی ہے شہر میں داخل سپاہ لگتا ہے
    گھر اور بھی ابھی ہوں گے تباہ لگتا ہے
    رئیس الدین رئیس
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  5. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اچھلے سر معصوموں کے بھی نیزوں پر
    شہر کا موسم اتنا کیوں سفاک ہوگیا
    رئیس الدین رئیس
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  6. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    حادثہ کیا ہؤا، شہر بے خواب ہے
    شور ہے جا بہ جا، شہر بے خواب ہے
    رئیس الدین رئیس
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  7. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    لوٹ آتی ہیں کیوں نیند کی دستکیں
    کیا ہؤا ہے خدا، شہر بے خواب ہے
    رئیس الدین رئیس
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  8. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    چمکتے شہر نے آنکھوں کو خیرہ کر دیا اتنا
    کہ مجھ سے شکل بھی اب اپنی پہچانی نہیں جاتی
    رئیس الدین رئیس
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  9. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    آج بھی گاؤں میں کچھ کچے مکانوں والے
    گھر میں ہمسائے کے فاقہ نہیں ہونے دیتے
    معراج فیض آبادی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 2
  10. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    اس شخص پر بھی شہر کے کتے جھپٹ پڑے
    روٹی اٹھا رہا تھا جو کُوڑے کے ڈھیر سے
     
    • زبردست زبردست × 2
  11. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    بجھ گیا شہر اور شہر کے لوگ
    کاغذوں پر دِئیے بناتے رہے
    مقصود وفا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. رباب واسطی

    رباب واسطی محفلین

    مراسلے:
    1,500
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Chatty
    آہ ہا۔۔۔!! جس پہ بیتتی ہے وہی جانتا ہے اور لوگ اسے دقیانوس کہتے رہتے ہیں
     
  13. رباب واسطی

    رباب واسطی محفلین

    مراسلے:
    1,500
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Chatty
    بے شک
    ہمارے دیہاتوں میں اچھی روایات قدریں ابھی باقی ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    بہت حد تک درست ہے، گو کہ اب شہروں کی وبا گاؤں میں بھی پہنچنا شروع ہو گئی ہے مگر اب بھی وہی ماحول باقی ہے، کچھ حد تک روایات بھی زندہ ہیں۔ آج بھی گھر میں جو پکتا ہے وہ آس پاس کے گھروں میں ضرور بھجوایا جاتا ہے۔ ایک دوسرے کی خوشی غمی کو اپنا سمجھ کر بانٹا جاتا ہے۔
     
    • متفق متفق × 1
  15. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    پھول چنتی دلربا، یادش بخیر
    گاؤں کی ٹھنڈی ہوا، یادش بخیر
     
  16. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    کرے نہ جگ میں الاؤ، تو شعر بے مصرف
    کرے نہ شہر میں جل تھل تو چشمِ نم کیا ہے
     
    • زبردست زبردست × 2
  17. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,160
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    بے نور ہوچکی ہے بہت شہر کی ہوا
    تاریک راستوں میں کہیں کھو نہ جائیں ہم
    حبیب جالب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  18. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    جیب میں رکھ لوں، ترے شہر میں، دونوں آنکھیں
    گاؤں جانے میں مجھے پھر نہ زمانے لگ جائیں
     
  19. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    تو شہر کی جاگتی رات ہے تو گاؤں کی سوجھل شام
    تو سرسوں کا وہ کھیت ہے جہاں جگنو کریں قیام
     
  20. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    2,903
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    تمہارے نقشِ پا سے سج گئے ہیں
    مِرے گاؤں کے رستے سج گئے ہیں
     

اس صفحے کی تشہیر