کیا یورپ کی ترقی مذہب کو ترک کرنے کی مرہون منت ہے؟

سید رافع نے 'تاریخ کا مطالعہ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 3, 2020

  1. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    اب کیا ڈراؤنے خواب کی تعبیر بھی معلوم کرنی ہے؟؟؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  2. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    جناب آپ سے ایک سوال کرنا چاہوں گا کہ کیا آپ نے کبھی مرزا قادیانی کے نبی ہونے کے جھوٹے دعویٰ کے پیچھے عوامل کا مطالعہ کیا ہے؟؟؟ کیوں مرزا نے مہدی اور نبی ہونے کا دعویٰ کیا تھا؟؟؟ کونسے وہ چور راستے تھے جن کو وہ بڑی چالاکی سے استعمال کرتا رہا اور پھر ان من گھڑت بنیادوں کو استعمال کرتے ہوئے اس نے نبوت کی عمارت عوام کے سامنے تعمیر کر کے کھڑی کردی تھی؟؟؟

    میں آپ کو مختصراً بتانا چاہوں گا کہ اس نے یہ چور راستے برصغیر میں پائے جانے والے گمراہ کن عقائد میں سے ہی تلاش کئے تھے!!! اور افسوس کا مقام یہ ہے کہ یہ گمراہ کن عقائد اس خطے کے علماء کے پھیلائے گئے عقائد تھے۔ یہ عقائد کسی کم علم انسان نے دین میں شامل نہیں کئے تھے۔ جیسے بڑے عالم نے چشتی رسول اللہ کا کلمہ پڑھوایا، خواب میں تھانوی رسول اللہ کے کلمہ کہنے پر عوام کو ٹوکا نہ گیا بلکہ اس واقعہ کو کتابوں میں درج کر کے عوام میں پھیلا دیا گیا، اپنے بزرگوں کو رحمۃ اللعالمین مانا گیا تو ایک جھوٹے نبی کا اعلان کرنا اس خطے میں ناگزیر ہی تھا۔ اگر آپ اس سب کے بارے میں مزید مطالعہ کرنے کا ارادہ رکھتے ہوں تو میرے ان مراسلوں کو ضرور پڑھئے گا۔

    مزارات پر عرس اور میلے، غیر اللہ کی نذر اور قبر پرستی

    عطاء اللہ ڈیروی صاحب کی کتاب کا مطالعہ

    مذہبی عقائد اور نظریات

    propaganda & propaganda tools

    کفریہ عقائد

    آزادیِ نسواں۔۔۔ آخری حد کیا ہے؟؟؟

    آزادیِ نسواں۔۔۔ آخری حد کیا ہے؟؟؟

    خلیل الرحمان قمرنے ٹی وی پر براہ راست ماروی سرمد کو گالی دیدی

    خلیل الرحمان قمرنے ٹی وی پر براہ راست ماروی سرمد کو گالی دیدی

    میں آپ سے ولی اللہ کے اخیتار میں صدورِ کرامت کا مستقل ہونا یا نہ ہونے کے بارے میں اسی لئے پوچھ رہا ہوں کہ آپ اس بات کی کھل کر وضاحت کر دیجئے کیونکہ اثباتِ کرامت میں غلو کرنے سے برصغیر میں بہت پیچییدگیاں پیدا ہوئی ہیں اور عام مسلمانوں میں بہت ساری غلط فہمیاں پیدا ہو گئی ہیں۔ ان گمراہ کن تعلیمات کی وجہ سے ہی ایمان کے بنیادی عقائد میں خرابی پیدا ہو جاتی ہے اس لئے ان کا بروقت سدباب کرنا بہت ضروری ہوتا ہے۔ یہ تشکیک نہیں ہے جناب یہ صرف بات واضح کرنے کے لئے آپ سے پوچھا گیا ہے!!!

    اور اگر وضاحت نہ کی جائے اور ایسی باتیں پھیلنے دی جائیں تو پھر کل کو کوئی بھی مرزا کی طرح انہی ذومعنی باتوں میں سے اپنے جھوٹے دعویٰ کے لئے جواز پیدا کرنے کے راستے نکال سکتا ہے اور ایسا میں اپنی طرف سے کبھی بھی ہونے دینا نہیں چاہوں گا!!!! اسی لئے میں ایسی ذومعنی باتوں کی وضاحت پر ضرور اصرار کرتا ہوں!!!!

    جہاں تک شرکاء محفل کو "کچھ" دکھانے کی بات ہے تو وہ میں پہلے دن سے یہاں پر کھل کر کہہ رہا ہوں کہ میرا مقصد عوام میں گمراہ کن عقائد کے حوالے سے شعور پیدا کرنا، عوام کو علماء کی اندھی تقلید سے روکنا اور خود تحقیق کرنے پر زور دینا ہے!!!! آپ کی مرضی ہے کہ آپ کچھ بھی میرے بارے میں کہتے رہیں مجھے کوئی فرق نہیں پڑتا ہے اور میرے مقصد کو واضح کرنے کے لئے میرے مراسلے ہی کافی ہیں!!!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  3. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    کہاں موافقت کی گئی ہے؟؟؟ کس قسم کی موافقت ہے؟؟؟ کیا آپ مجھے دکھانا پسند کریں گے؟؟؟
     
    • زبردست زبردست × 1
  4. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213

    انا للہ وانا الیہ راجعون!
    حد ہوتی ہے صاحب!!! مجھے تو سمجھ بھی نہیں آرہا ہے کہ میں کیا کہوں!!!
    آپ کے لئے بس دعا ہی کر سکتا ہوں!
     
    • زبردست زبردست × 1
  5. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    حضور یہ آپکے ہی الفاظ ہیں " خاص کر حرام سود سے بنا جسم کوئی نورانی کام کر نہیں سکتا" یہ میں نے اپنی طرف سے نہیں لکھا ہے!!! آپ نے جو لکھا ہے اسے قبول کرنے کی بھی ہمت رکھئے!!! دوسروں پر اپنا ملبہ ڈالنے کی کوشش نہ کریں!!!!

     
    • متفق متفق × 1
  6. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    عطاری ہیں اور یہ بھی چاہتے ہیں کہ آپکے فرقے کی بات نہ کی جائے!!! حضور یقین جانئے آپ کے فرقہ کے نجانے کتنے ہی افراد سے بحث ہوتی رہی ہے صرف دس منٹ لگتے ہیں بریلوی اور دیوبندی کو پہچانے میں!!! آپ غیر محسوس طریقے سے انہی عقائد کو عام کرنے کی کوشش کرتے ہیں جن کی آپ کے فرقے میں تعلیم دی جاتی ہے جیسے نور بڑھنا وغیرہ انہی سے آپ اور آپ کے ساتھیوں کو پہچان لیا جاتا ہے!!!

    حضور آپ سوال کی گنجائش پیدا کر رہے ہیں تو سوال کیا جا رہا ہے نا!!! دین میں غور و فکر پر زور دیا گیا ہے اور غور و فکر سوال جواب کر کے ہی ممکن ہے۔

    جناب میں بہت اچھی طرح بریلویوں اور دیوبندیوں کے بارے میں جانتا ہوں!!! میں الحمدللہ جیسا ہوں اب ویسا ہی رہنا پسند کروں گا۔ مجھے عطاریہ میں شامل ہو کر یہ سب کرنے کا بالکل بھی شوق نہیں ہے!!!



     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  7. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    آپ کا کہنا ہے کہ اسلامی ممالک مسلمان بنانے کی فیکٹریاں ہیں۔ تو پھر یہاں کے علماء کی اکثریت کے چند عقائد کا کیوں نہ جائزہ لے لیا جائے؟؟؟؟

    عقیدہ توحید میں وحدت الوجود اور امکان کذب کی صورت میں اضافہ، نہ صرف یہ عقائد ہیں بلکہ خدا کا جسم رکھنا اور اللہ تعالیٰ نعوذباللہ قبیحہ افعال کر سکتا ہے جیسے عقائد کی ترویج بھی ان کی کتب میں پائی جاتی ہے۔ رسول اللہ صلیہ علیہ وسلم کے علاوہ اپنے بزرگوں کو رحمۃ اللعالمین ماننا، اپنے بزرگوں پر وحی نازل ہونے اور ان کا عمل میں انبیاء علیہم السلام سے بڑھ جانے، انبیاء کرام علیہم السلام کے جھوٹ بولنے اور معصوم نہ ہونے اپنی کتب میں تعلیم دینا، تحریفِ قرآن اور خاتم النبیین میں معنوی تحریف جیسی باتیں بھی ان کی کتب میں شامل ہیں۔ نماز کے متعلق ان کے احکامات پڑھیں اور صحیح احادیث کو پڑھیں، صاف تضاد نظر آجائے گا۔ صرف نماز ہی کیا اور بھی نجانے کتنے احکامات ہیں جو صحیح احادیث سے متصادم ہیں پھر بھی فقہ میں ان کو مانا جاتا ہے۔

    اس کے علاوہ عرس کے نام پر نہ صرف مزاروں میں قبر پرستی کی جاتی ہے بلکہ "اور" بھی بہت کچھ ہوتا ہے۔ عرس نام پر ان میلوں میں جوئے کے اڈے، وجد کے نام پر ناچ گانا، زنا اور بدکاری سب چل رہا ہوتا ہے جیسا کہ اس مضمون میں احمد رضا خان صاحب ملفوظات احمد رضا ص 275-276 میں ایک کنیز کا واقعہ درج فرماتے ہیں۔ واقعہ لال رنگ سے نمایاں کیا گیا ہے۔

    مزارات پر عرس اور میلے، غیر اللہ کی نذر اور قبر پرستی

    ان عقائد کی تعلیمات اور مزاروں پر عرس کے نام پر بد اعمالیوں کے ساتھ آپ کے ملک میں ایک مسلمان کا صحیح العقیدہ رہنے کے کتنے امکانات ہو سکتے ہیں؟
     
    • زبردست زبردست × 1
  8. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    213
    کسی بھی مسلمان کے باطنی ایمان کے بارے میں خدائے رب العزت ہی علم رکھتے ہیں اور اس آیت سے یہ واضح ہے۔ میں یا آپ اس کا کسی صورت فیصلہ نہیں کر سکتے ہیں کہ کس کے دل میں کیا ہے؟

    آپ کیسے قتل کرنے کا جواز پیدا کر سکتے ہیں جب کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم یہ فرما رہے ہیں کہ تو نے اس کا دل چیر کر دیکھا تھا؟ کیا اس قتل کی رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے حمایت کی ہے؟؟؟ یہاں پر رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی اس سلسلے میں مذمت سے واضح ہے کہ ہم میں سے کوئی بھی کسی کے ایمان کا فیصلہ کرنے والا نہیں ہوسکتا ہے۔

    بہت ہی افسوس کے ساتھ کہنا پڑ رہا ہے کہ آپ قبر پرستی کی وکالت میں اتنے آگے نکل گئے کہ نہ صرف آپ نے ظاہری توحید اور باطنی توحید کو ایمان کی شاخوں میں شمار کیا بلکہ دفاع میں جتنی بھی احادیث اور آیت قرآنی اس ضمن میں پیش کیں ان سے صاف طور پر واضح ہونے کے باوجود کہ باطنی ایمان کا علم صرف خدا کے پاس ہے آپ اپنی بات منوانے پر تلے رہے۔

    کیا آپ کو واقعی نظر نہیں آرہا ہے کہ جو آپ کہہ رہے ہیں اس کے برعکس آیتِ قرآنی اور احادیث میں کیا فرمایا جا رہا ہے؟؟؟؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  9. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    20,603
    اور ان سیکولر مضامین کو پڑھانے والے بھی عین مذہبی لوگ ہوں گے۔ ایسے کیسے سیکولر تعلیم دیں گے؟
     
  10. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    20,603
    دنیاوی تعلیم اگر جہالت ہے تو آپ دور حاضر کی جدید ٹیکنالوجیز جو دنیاوی تعلیم سے نکلی ہیں کا استعمال کب ترک کر رہے ہیں؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. فاروق سرور خان

    فاروق سرور خان محفلین

    مراسلے:
    3,131
    جھنڈا:
    UnitedStates
    موڈ:
    Breezy
    کیا یورپ کی ترقی مذہب کو ترک کرنے کی مرہون منت ہے؟
     
    • متفق متفق × 1
  12. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    20,603
    100 فیصد
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. فاروق سرور خان

    فاروق سرور خان محفلین

    مراسلے:
    3,131
    جھنڈا:
    UnitedStates
    موڈ:
    Breezy
    یہی موضوع ہے :)
     
    • متفق متفق × 1
  14. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    20,603
    یہ ٹیڑھی دُم سیدھی ہونے والی نہیں۔
    • پاپائیت میں مسیحیوں کو جنت میں بھیجنے کیلئے چندے لئے جاتے تھے۔ مولویت میں قبروں پر چڑھاوے، مساجد کی تعمیر، جہاد کیلئے چندے لئے جاتے ہیں
    • پاپائیت میں کیتھولک پادریوں کی مسیحی تعلیم کے خلاف جانا دین سے بغاوت تھا۔ مولویت میں علما کرام کی اسلامی تعلیم سے اختلاف کرنا اپنے خلاف کفر اور قتل کے فتووں کو للکارنا ہے
    • پاپائیت میں صلیبی جنگیں عام تھیں۔ مولویت میں جہاد کے نام پر دہشتگردی عام ہے
    پاپائیت و مولویت کو ختم کئے بغیر کوئی معاشرہ ترقی نہیں کر سکتا۔ اب یہ بات تاریخ سے ثابت شدہ ہے کہ عالم اسلام کا زوال علما-حکمران طبقے کے اتحاد کے بعد شروع ہوا۔ اور اب علما-حکمران-عدلیہ اتحاد نے اس زوال کو چار چاندمزید لگا دئے ہیں

    Why Muslim-majority countries need secular citizenship and law-making
     

اس صفحے کی تشہیر