امجد اسلام امجد کہو مجھ سے محبت ہے - امجد اسلام امجد

پاکستانی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 11, 2006

  1. پاکستانی

    پاکستانی محفلین

    مراسلے:
    4,529
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Brooding
    محبت کی طبعیت میں یہ کیسا بچپناقدرت نے رکھاہے !
    کہ یہ جتنی پرانی جتنی بھی مضبوط ہو جائے
    ا سے تائید تازہ کی ضرورت پھر بھی رہتی ہے
    یقین کی آخر ی حد تک دلوں میں لہلہاتی ہو !
    نگاہوں سے ٹپکتی ہو ‘ لہو میں جگمگاتی ہو !
    ہزاروں طرح کے دلکش ‘ حسیں ہالے بناتی ہو !
    ا سے اظہار کے لفظوں کی حاجت پھر بھی رہتی ہے
    محبت مانگتی ہے یوں گواہی اپنے ہونے کی
    کہ جیسے طفل سادہ شام کو اک بیج بوئے
    اور شب میں بار ہا اٹھے
    زمیں کو کھود کر دیکھے کہ پودا اب کہاں تک ہے !
    محبت کی طبعیت میں عجب تکرار کی خو ہے
    کہ یہ اقرار کے لفظوں کو سننے سے نہیں تھکتی
    بچھڑ نے کی گھڑ ی ہو یا کوئی ملنے کی ساعت ہو
    اسے بس ایک ہی دھن ہے
    کہو ’’مجھ سے محبت ہے ‘‘
    کہو ’’مجھ سے محبت ہے ‘‘
    تمہیں مجھ سے محبت ہے
    سمندر سے کہیں گہری ‘ستاروں سے سوا روشن
    پہاڑوں کی طرح قائم ‘ ہوا ئوں کی طرح دائم
    زمیں سے آسماں تک جس قدر اچھے مناظر ہیں
    محبت کے کنائے ہیں ‘ وفا کے استعار ے ہیں ہمارے ہیں
    ہمارے واسطے یہ چاندنی راتیں سنورتی ہیں سنہر ا دن نکلتا ہے
    محبت جس طرف جائے ‘ زمانہ ساتھ چلتا ہے ‘‘
    کچھ ایسی بے سکو نی ہے وفا کی سر زمیوں میں
    کہ جو اہل محبت کی سدا بے چین رکھتی ہے
    کہ جیسے پھول میں خوشبو‘ کہ جیسے ہاتھ میں پاراکہ جیسے شام کاتارا
    محبت کرنے والوں کی سحر راتوں میں ر ہتی ہے ‘
    گماں کے شاخچوں میں آشیاں بنتا ہے الفت کا !
    یہ عین وصل میں بھی ہجر کے خد شوں میں رہتی ہے ‘
    محبت کے مسافر زند گی جب کا ٹ چکتے ہیں
    تھکن کی کر چیاں چنتے ‘ وفا کی اجر کیں پہنے
    سمے کی رہگزر کی آخری سر حد پہ رکتے ہیں
    تمہیں مجھ سے محبت ہے
    تو کوئی ڈوبتی سانسوں کی ڈوری تھا م کر
    دھیرے سے کہتا ہے
    ’’یہ سچ ہے نا !
    ہماری زند گی اک دو سرے کے نام لکھی تھی !
    دھند لکا سا جو آنکھوں کے قریب و دور پھیلا ہے
    ا سی کا نام چاہت ہے !
    تمہیں مجھ سے محبت تھی
    تمہیں مجھ سے محبت ہے !!‘‘
    محبت کی طبعیت میں
    یہ کیسا بچپنا قدرت نے رکھا ہے !


    امجد اسلام امجد
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  2. دوست

    دوست محفلین

    مراسلے:
    13,079
    جھنڈا:
    Germany
    موڈ:
    Fine
    اچھی لگی۔
     
  3. پاکستانی

    پاکستانی محفلین

    مراسلے:
    4,529
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Brooding
    شکریہ شاکر بھائی
     
  4. جیا راؤ

    جیا راؤ محفلین

    مراسلے:
    1,888
    "کہو مجھ سے محبت ہے !" امجد اسلام امجد

    محبت کی طبیعیت میں
    یہ کیسا بچپنا قدرت نے رکھا ہے
    کہ یہ جتنی پرانی، جتنی بھی مضبوط ہو جائے
    اسے تائیدِ تازہ کی ضرورت پھر بھی رہتی ہے

    یقیں کی آخری حد تک دلوں میں لہلہاتی ہو
    نگاہوں سے ٹپکتی ہو، لہو میں جگمگاتی ہو
    ہزاروں طرح سے دلکش، حسیں ہالے بناتی ہو
    اسے اظہار کے لفظوں کی حاجت پھر بھی رہتی ہے !

    محبت مانگتی ہے یوں گواہی اپنے ہونے کی
    کہ جیسے طفلِ سادہ شام کو اک بیج بوئے
    اور شب میں بارہا اٹھے
    زمیں کو کھود کر دیکھے
    کہ پودا اب کہاں تک ہے !

    محبت کی طبیعیت میں عجب تکرار کی خو ہے
    کہ یہ اقرار کے لفظوں کو سننے سے نہیں تھکتی
    بچھڑنے کی گھڑی ہو یا کوئی ملنے کی ساعت ہو
    اسے بس ایک ہی دھن ہے

    "کہو مجھ سے محبت ہے !"
    "کہو مجھ سے محبت ہے !"
    "تمہیں مجھ سے محبت ہے !"

    کچھ ایسی بے سکونی ہے وفا کی سر زمینوں میں
    کہ جو اہلِ محبت کو سدا بے چین رکھتی ہے
    کہ جیسے پھول میں خوشبو، کہ جیسے ہاتھ میں پارہ،
    کہ جیسے شام کا تارہ !

    محبت کرنے والوں کی سحر راتوں میں رہتی ہے
    گماں کی شاخچوں پر آشیاں بنتا ہے الفت کا
    یہ عین وصل میں بھی ہجر کے خدشوں میں رہتی ہے

    محبت کے مسافر زندگی جب کاٹ چکتے ہیں
    تھکن کی کرچیاں چنتے، وفا کی اجرکیں پہنے
    سمے کی راہگزر کی آخری سرحد پہ رکتے ہیں
    تو کوئی ڈوبتی سانسوں کی ڈوری تھام کر
    دھیرے سے کہتا ہے

    " یہ سچ ہے ناں !
    ہماری زندگی اک دوسرے کے نام لکھی تھی
    یہ دھندلکا سا جو نگاہوں سے قریب و دور پھیلا ہے
    اسی کا نام چاہت ہے !

    تمہیں مجھ سے محبت تھی !
    تمہیں مجھ سے محبت ہے !"

    محبت کی طبیعیت میں یہ کیسا بچپنا قدرت نے رکھا ہے !


    امجد اسلام امجد
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 11
  5. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,696
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ جیا راؤ شیئر کرنے کیلیئے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  6. ابوشامل

    ابوشامل محفلین

    مراسلے:
    3,253
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    بہت اعلٰی انتخاب۔ پیش کرنے کا بہت شکریہ جیا!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. زونی

    زونی محفلین

    مراسلے:
    4,268
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused

    خوبصورت نظم ھے !


    بہت شکریہ جیا شئیر کرنے کیلئے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  8. امیداورمحبت

    امیداورمحبت محفلین

    مراسلے:
    3,074
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بہت خوب جیا یہ ہمیشہ ہی اچھی لگتی ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. جیا راؤ

    جیا راؤ محفلین

    مراسلے:
    1,888
    جی واقعی یہ نظم جب پڑھی جائے پہلے سے زیادہ خوبصورت لگتی ہے۔
    آپ تمام خواتین و حضرات کی پسندیدگی کا بے حد شکریہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  10. فاروقی

    فاروقی معطل

    مراسلے:
    1,748
    میں سچ کہوں گا تو مار پڑے گی. . .:beating:
     
  11. جیا راؤ

    جیا راؤ محفلین

    مراسلے:
    1,888
    کیوں مار پڑے گی:eek:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. ناعمہ عزیز

    ناعمہ عزیز لائبریرین

    مراسلے:
    23,247
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Where
    محبت کی طبیعت میں
    یہ کیسا بچپنا قدرت نے رکھا ہے​
    کہ یہ جتنی پرانی جتنی بھی مضبوط ہو جائے
    اِسے تائیدِ تازہ کی ضرورت پھر بھی رہتی ہے
    یقیں کی آخری حد تک دلوں میں لہلہاتی ہو
    ہزاروں طرح کے دلکش حسیں ہالے بناتی ہو
    اسے اظہار کے لفظوں کی حاجت پھر بھی رہتی ہے​
    محبت مانگتی ہے یُوں گواہی اپنے ہونے کی
    کہ جیسے طفلِ سادہ شام کو اِک بیج بوئے
    اور شب میں اُٹھے
    زمیں کو کھود کر دیکھے
    کہ پودا اب کہاں تک ہے؟؟؟​
    محبت کی طبیعت میں عجب تکرار کی خَو ہے
    کہ یہ اقرار کے لفظوں کو سننے سے نہیں تھکتی
    بچھڑنے کی گھڑی ہو یا کوئی ملنے کی ساعت ہو
    اسے بس ایک ہی دھن ہے
    کہو مجھ سے محبت ہے
    کہو مجھ سے محبت ہے
    تمھیں مجھ سے محبت ہے
    سمندر سے کہیں گہری
    ستاروں سے سوا روشن
    ہواؤں کی طرح دائم
    پہاڑوں کی طرح قائم​
    کچھ ایسی بے سکونی ہے وفا کی سرزمینوں میں
    کہ جو اہلِ محبت کو سدا بے چین رکھتی ہے
    کہ جیسے پھول میں خوشبو کہ جیسے ہاتھ میں تارا
    کہ جیسے شام کا تارا
    محبت کرنے والوں کی سحر راتوں میں رہتی ہے
    گُمنام کے شاخوں میں آشیانہ بناتی ہے اُلفت کا
    یہ عین وصال میں بھی ہجر کے خدشوں میں رہتی ہے​
    محبت کے مسافر زندگی جب کاٹ چکتے ہیں
    تھکن کی کرچیاں چنتے وفا کی اجرکیں پہنے
    سمے کی راہ گزر کی آخری سرحد پہ رُکتے ہیں
    تو کوئی ڈوبتی سانسوں کی ڈوری تھام کر
    دھیرے سے کہتا ہے
    کہ یہ سچ ہے نا
    ہماری زندگی اک دوسرے کے نام لکھی تھی
    دُھندلکا سا جو آنکھوں کے قریب و دُور پھیلا ہے
    اسی کا نام چاہت ہے
    تمھیں مجھ سے محبت ہے
    تمھیں مجھ سے محبت ہے​
    شاعر “امجد اسلام امجد”​
     
    • زبردست زبردست × 10
    • پسندیدہ پسندیدہ × 8
  13. مہ جبین

    مہ جبین محفلین

    مراسلے:
    6,246
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    لاجواب اور بے مثال نظم ہے
    کیا خوبصورت نظم کہی ہے امجد اسلام امجد نے ، بہت زبردست، میری پسندیدہ نظم ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  14. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,389
    عمدہ نظم۔ عمدہ انتخاب۔ بہت خوب۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  15. امیداورمحبت

    امیداورمحبت محفلین

    مراسلے:
    3,074
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بہت خوبصورت ناعمہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,696
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    بہت شکریہ آپ کا پوسٹ کرنے کیلیے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  17. ناعمہ عزیز

    ناعمہ عزیز لائبریرین

    مراسلے:
    23,247
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Where
    نایاب انکل میری پسندیدہ نظم ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  18. نایاب

    نایاب لائبریرین

    مراسلے:
    13,421
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Goofy
    یہ میری ڈائری کب سے چرا لی بٹیا
    عجب تاثر عجب گہرائی
    کوئی بھی لفظ بے معنی نہیں لگتا ۔
    اک نظم مسلسل ہے جو کہ قاری کو سحرزدہ کیئے جاتی ہے ۔
    منظر تشکیل کیئے جاتی ہے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  19. عاطف بٹ

    عاطف بٹ محفلین

    مراسلے:
    5,527
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused
    بہت خوبصورت نظم ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  20. لالہ رخ

    لالہ رخ محفلین

    مراسلے:
    887
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Torn
    بہت کمال انتخاب ۔۔۔
     

اس صفحے کی تشہیر