کرونا وائرس: بائیولوجیکل ہتھیار یا قدرتی آفت؟

La Alma نے 'طب اور صحت' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مارچ 29, 2020

  1. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,568
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    میری عادت ہے کہ میں کسی بھی جاری مسئلے پر کم پڑھتا اور کم سنتا ہوں اور جب وہ مسئلہ بیٹھ جاتا ہے، کچھ جذبات سرد ہوتے ہیں، کچھ چھپی باتیں ظاہر ہوتی ہیں اور جب کسی حد تک تصویر کے دونوں رخ نظر آنے لگتے ہیں تو پھر اس پر اپنا وقت صرف کرتا ہوں اور فی الحال کووڈ-19 کے ساتھ بھی یہی کر رہا ہوں لیکن کچھ سوال میرے ذہن میں ضرور موجود ہیں:

    کیا انسان اس بات پر قادر ہے کہ بائیولوجیکل ہتھیار بنا سکے؟
    اگر قادر ہے اور اس کے باوجود ہتھیار نہیں بناتا تو کیا دنیا میں ایسی کوئی طاقت موجود ہے جو اس کو ہتھیار بنانے سے روکتی ہے؟
    اگر قادر ہے اور اس کے باجود ہتھیار نہیں بناتا تو کیاانسان کو کسی اخلاقی قدر نے ایسا کرنے سے روک رکھا ہے؟

    اگر تو کسی طاقت نے روک رکھا ہے تو اسکی تلاش مجھے بھی ہے اور اگر انسان اخلاقی وجوہات کی بنا پر ایسے ہتھیار نہیں بناتا تو اسکی عظمت کو سلام!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 10
    • زبردست زبردست × 2
  2. سین خے

    سین خے محفلین

    مراسلے:
    2,329
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    لیب میں واٸرس بنانےکے لٸے ایسے واٸرس کو لیا جاتا ہے جو کہ انسان میں بیماری پیدا کرنے کے قابل ہو۔ اس کو ریورس انجنٸیر کر کے پھر باٸیو ویپن بنایا جا سکتا ہے۔

    فی الحال اتنی ترقی نہیں ہوٸی ہے کہ ایک ایسا واٸرس بنا دیا جاٸے جو کہ انسانی جسم میں پہلے کبھی بیماری پیدا کرنے کے قابل نہ رہا ہو۔

    اس سلسلے میں میرے خیال سے biopreparat کےبارے میں پڑھنا دلچسپ رہے گا۔ یہاں بھی قدرتی طور پر پائے جانے والے واٸرسز کو weaponize کیا جاتا رہا ہے۔

    Biopreparat - Wikipedia
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • متفق متفق × 1
  3. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    شاید یہ سوال کہ بنا تو چلو لیں گے، پھر قابو کیسے کریں گے۔ :rolleyes:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  4. La Alma

    La Alma لائبریرین

    مراسلے:
    2,105
    قطعیت میں امکان کی ویلیو صفر ہوتی ہے۔ جہاں کسی شے کی موجودگی یا غیر موجودگی کو ثابت کرنا باقی ہو وہاں امکان کبھی زیرو نہیں ہوتا۔ ممکن اور غیر ممکن کے بیچ ہزاروں امکانات ہوتے ہیں۔سائنس تو ویسے بھی انتہائی وسیع میدان ہے۔ اس لیے قطعیت سے اس بات کا انکار یااقرار نہیں کیا جا سکتا کہ انسان ابھی بائیولوجیکل ہتھیار بنانے کے قابل ہواہے یا نہیں۔
    بالفرض بنا بھی لیا ہو تو کیا یہ توقع رکھنی درست ہو گی کہ ان کی تحقیقات کی عام پبلک تک کھلم کھلا رسائی ہو گی۔ عالمی طاقتوں کے اپنے اپنے خفیہ ایجنڈےاور مفادات ہوتے ہیں جنہیں یقینی طور پر ٹاپ سیکرٹ ہی رکھا جاتا ہو گا۔
    سر فہرست انٹرنیشنل لاز ہی ہیں جو ایسا کرنے سے روکتے ہیں۔ لیکن ان کی کیاکریڈیبیلیٹی ہے وہ سبھی جانتے ہیں۔ نیوکلئیر اور کیمیائی ہتھیار بنانے پرپابندی کا اطلاق بھی سب پر یکساں نہیں ہے۔ ایک طرف ایران کو صرف یورینیم افزودگی پر کئی سینکشنز کا سامنا ہے اور دوسری طرف ہیروشیما اور ناگاساکی کاایٹمی حملوں سے جو حال کیا گیا وہ سب کو معلوم ہے۔
    اخلاقی اقدار تو اس بات کی اجازت بھی نہیں دیتیں کہ ڈرون حملے کیے جائیں۔دیگر مہلک ہتھیاروں کے استعمال سے ہزاروں، لاکھوں لوگوں کی جان لیجائے۔ اگر اخلاقی اقدار کی بنا پر فیصلہ کرنا ہو تو بائیولوجیکل ہتھیاروں یا وائرس وغیرہ کا جنگی استعمال مُقابلتاً محفوظ طریقہ کار ہے۔ روایتی جنگوں میں انسانی جان کے علاوہ دیگر حیات ارضی، جانور، چرند پرند، جنگلات، نباتات،سڑکیں، پل، عمارتیں الغرض پورا انفرا سٹرکچر تباہ ہو جاتا ہے۔ سب کچھ سکریچ سے شروع کرنا پڑتا ہے۔ جبکہ بائیولوجیکل وار میں صرف مخصوص کمیونٹی کو ہی ٹارگٹ کیا جاتا ہے۔ لہذا یہ جواز بھی نہیں دیا جا سکتا کہ اخلاقی اقدار ایسے ویپنز کی تیاری کی راہ میں مزاحم ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
    • زبردست زبردست × 2
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  5. زاہد لطیف

    زاہد لطیف محفلین

    مراسلے:
    359
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  6. سین خے

    سین خے محفلین

    مراسلے:
    2,329
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    آگر کسی جانور سے رینڈم وائرس لے کر جو کہ ہزاروں کی تعداد میں ہیں اور پھر لاکھوں کروڑوں میوٹیشنز میں سب سے مناسب میوٹیشن چن کر اسے میوٹیٹ کروایا گیا ہے تو واقعی یہ انسانی تاریخ کا سب سے بڑا کارنامہ قرار دیا جا سکے گا۔ اور یہ اسی وقت ممکن ہوگا جب ہر میوٹیشن (جو کہ لاکھوں کروڑوں میں ہو سکتی ہیں جاندار کے جینوم کو مد نظر رکھتے ہوئے) کا desired result بھی انسان معلوم کر چکا ہو خفیہ ریسرچز میں، تو یہ واقعی بہت بڑی بات ہوگی۔ یہ بھی ذہن میں رہے کہ جینومک سیکوئینسنگ میں کتنا پیسہ خرچ ہوتا ہے اور اس طرح کسی رینڈم وائرس کی تلاش اور پھر اسے انسانی جسم کے لئے میوٹیٹ کروانے کے لئے کس قسم کی فنڈنگ اور ٹیکنالوجی اور کمپیوٹر سسٹمز اور سافٹ وئیرز کی ضرورت ہوگی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  7. فاخر رضا

    فاخر رضا محفلین

    مراسلے:
    3,239
    کیا کسی نے بل گیٹس کی گفتگو سنی جو شاید ٢٠١٥ میں کی گئی جس میں ایک وائرس پینڈیمک کا ذکر ہے.
    یہ کیسے predict کرتے ہیں.
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • متفق متفق × 1
    • غمناک غمناک × 1
  8. فاخر رضا

    فاخر رضا محفلین

    مراسلے:
    3,239
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • غمناک غمناک × 1
  9. La Alma

    La Alma لائبریرین

    مراسلے:
    2,105
    جی ، سپیشل کمپیوٹر سسٹمز اور سافٹ ویئرز کی ضرورت ہوگی وگرنہ اینٹی وائرس پروگرامز اس وائرس کو ڈی بگ کر دیں گے۔ :):):)
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  10. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    جب ماضی میں درجنوں مثالیں موجود ہوں تو مستقبل میں ملتے جلتے مسائل کے امکان کی پیشن گوئی کون سا مشکل کام ہے۔ حیرت کی بات یہ نہیں کہ بل گیٹس نے ماضی کی مثالوں سے کیسے سیکھا۔ حیرت کی بات یہ ہے کہ باقی سب نے کیوں کچھ نہیں سیکھا اور اس معاملے کو اتنا سنجیدہ نہیں لیا جتنا لینا چاہیے تھا۔ حالانکہ 2003ء کی سارس کی وباء کی مثال سامنے تھی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • متفق متفق × 2
    • زبردست زبردست × 1
  11. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    حیاتیاتی ہتھیار کا قابو سے باہر ہونا زیادہ آسان ہے۔ اگر مقصد یہ ہو کہ اثرات ایک مخصوص کمیونٹی سے باہر نہ نکلیں تو روایتی، ایٹمی اور کیمیائی ہتھیار کہیں بہتر طور پر یہ کام کرتے ہیں۔ اگر مقصد ساتھ میں یہ بھی ہو کہ اپنے اوپر الزام نہ آئے تو وہاں کسی طرح خانہ جنگی شروع کروا دینے سے بہتر شاید ہی کوئی آپشن ہو۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • متفق متفق × 1
  12. محمدظہیر

    محمدظہیر محفلین

    مراسلے:
    2,949
    بل گیٹس ونڈوز 95 سے وائرس سے لڑ رہے ہیں
     
    • پر مزاح پر مزاح × 5
    • متفق متفق × 1
  13. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    16,469
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused
    "آر این اے وائرس "بہت جلد میوٹیٹ ہوتا ہے۔ وائرس کی ویکسین جو آج بنائی جائے گا پانچ سال بعد غیر موثر ہوگی۔
    ویکسین ان لوگوں کو لگائی جائے گی جو ابھی وائرس کا شکار نہیں ہیں اور ان کی تعداد دنیا کی آبادی کا 99 فیصد ہے۔
    فارما کمپینیاں کتنے پیسے کمائیں گی۔ یہ تصور کر لیجیے
     
    • پر مزاح پر مزاح × 2
  14. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    اور اس سے ہمیں کیا نتیجہ نکالنا چاہیے؟ اس نتیجے تک پہنچنے کے لیے درکار سٹیپس کیا ہیں؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  15. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    16,469
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused
    وائرل انفیکشن سے متاثر ہ مریضوں کی شرح اموات کا ڈیٹا
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  16. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    اس سے کیا ثابت ہو گا؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  17. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    16,469
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused
    برائے تفہیم
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  18. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    • زبردست زبردست × 2
  19. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    16,469
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused
    قدرت کے بنائے ہوئے امیون سسٹم کی کیا ضرورت ہے اور امیون سسٹم کو طاقتور بنانے کے بجائے ویکسین لگاتے جائیں جو پانچ سال بعد غیر موثر ہو جائے؟
    جب کہ وائرل انفیکشن سے ہونے والی شرح اموات 2 فیصد سے کم ہے۔تو آپ چاہتے ہیں کہ یہ شرح اموات 0 ہو جائے تا کہ آپ کبھی بھی مر نہ سکیں لیکن آر این اے وائرس نے آپ کا یہ پلان فیل کر دینا ہے کیوں کہ اس کی نئی میوٹیشن نے آپ کی ویکسین فیل کر دینی ہے اور پھر آپ کو موت آنی ہی آنی ہے۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 2
  20. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,861
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    ایسے تبصرے کے بعد آپ کو اس موضوع پر سنجیدہ لینا مشکل ہو گیا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1

اس صفحے کی تشہیر