يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُواْ ۔ اے ایمان والو !!!

الشفاء نے 'قران فہمی' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 23, 2018

  1. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ تمام شادی شدہ جوڑوں کو شیطان کی شر انگیزی سے بچائے اور ایک دوسرے کی آنکھوں کی ٹھنڈک بنائے۔ آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • متفق متفق × 1
  2. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں اپنے نبیﷺ کا کہنا ماننے کی توفیق اور آسانی دے۔ آمین!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں توفیق و آسانی دے کہ زیادہ سے زیادہ درود ع سلام بھیجیں اپنے پیارے پیارے نبیﷺ پہ۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں عمل کی توفیق اور آسانی عطا فرمائے۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    سمجھ نہیں آئی۔

    حکم کی وجہ تو سمجھ آتی ہے لیکن منسوخ کی حکمت سمجھ نہیں آرہی۔
     
  6. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں نہ صرف عمل کی توفیق اور آسانیاں عطا فرمائے بلکہ ہمیں یہ بھی توفیق دے کہ کوئی ایسی حرکت نہ کریں جو اللہ کے غضب کو دعوت دینے او پیارے نبیﷺ کو ہم سے ناراض کرنے والی ہو۔ آمیں!اللہ ہماری کوہتائیاں معاف فرمائے۔ آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • متفق متفق × 1
  7. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں اپنی اور اپنے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی اطاعت کی توفیق اور آسانی عطا فرمائے۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  8. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں عمل کی توفیق اور آسانی عطا فرمائے۔آمین!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ان کے ذکر کی محفل ہو خاص طور پہ روضئہ رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پہ جب بھی جائیں،بھگدڑ ،شورو غل اور ایک دوسرے کو دھکے دینے سے حتی الامکان بچنے کی توفیق دے اللہ کریم۔وہاں ہمیں سارے آداب کے ساتھ حاضری کی توفیق اور آسانی دے۔اور ہاں ہمیں بار بار بار بار۔۔۔۔۔۔بلائے۔آمین!ثم آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • متفق متفق × 1
  10. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں عمل کی توفیق اور آسانی عطا فرمائے۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ ہمیں عمل کی توفیق اور آسانی دے اور ہم پر اپنا خاص لطف و کرم کرے۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اللہ محفوظ فرمائے اور ہمیں ایسے کسی بھی گناہ سے پناہ دے۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ابھی کچھ آیات رہتی ہیں۔
    ماشاءاللہ بہت اچھی کوشش ہے۔اللہ قبول و منظور فرمائے اور مزید کوشش کی توفیق اور آسانی عطا فرمائے۔ان سب کوششوں کا بہترین اجر دونوں جہانوں میں عطا فرمائے۔خوشیاں اور آسانیاں دے۔گھر والوں سے آنکھوں کی ٹھنڈک عطا فرمائے۔صحت و عافیت عنایت کرے۔اپنے حفظ و امان میں رکھے۔آمین!
    جزاک اللہ خیرا کثیرا۔
     
    • متفق متفق × 2
  14. الشفاء

    الشفاء لائبریرین

    مراسلے:
    2,949
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    تفسیر مظہری میں ترک حیلہ سے مراد " قطع اسباب" بھی لکھا ہے۔ شاید اس سے تقدیر کے مقابلے میں اپنی تدبیر سے دستبردار ہو جانا مراد ہو جو کہ اولوالعزم لوگوں کا خاصہ ہے۔۔ ویسے بھی یہ "مدینۃ العلم" اور "باب مدینۃ العلم " کے مابین سوال و جواب ہیں اس لیے وہی بہتر جانتے ہیں۔۔۔

    جب اللہ تعالیٰ نے اہل ایمان کے خوف اور ہر سرگوشی کے وقت ان پر صدقات کی مشقت کو ملاحظہ فرمایا تو ان پر معاملے کو آسان کر دیا اور سرگوشی کرنے سے قبل صدقہ ترک کرنے پر مواخذہ نہیں فرمایا۔ البتہ رسول اللہ ﷺ کی تعظیم اور آپ کا احترام باقی رکھا اس کو منسوخ نہیں فرمایا۔ کیونکہ سرگوشی سے قبل صدقہ مشروع لغیرہ کے باب سے ہے فی نفسہ مقصود نہیں۔ اصل مقصد تو رسول اللہ ﷺ کا ادب اور اکرام ہے۔۔۔ (تفسیر السعدی)۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. الشفاء

    الشفاء لائبریرین

    مراسلے:
    2,949
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    اللہ عزوجل اخلاص بھی عطا فرمائے۔ اور ان دعاؤں کو آپ کے حق میں بھی قبول فرمائے۔ جزاک اللہ الف خیر۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. ہمت علی

    ہمت علی معطل

    مراسلے:
    51
    امین
    قرآن کریم میں شرپسند عورتوں کے بارے میں کیا حکم ہے؟
     
  17. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    15,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    اونٹ باندھو اور توکل کرو۔
    انسان کو وہی کچھ ملتا ہے جس کے لئے وہ کوشش کرتا ہے۔
    مزید سمجھنا چاہتی ہوں۔
    اللہ ہمیں سمجھنے کی توفیق و آسانی دے۔آمین!
     
  18. الشفاء

    الشفاء لائبریرین

    مراسلے:
    2,949
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    جی بالکل۔ ہمیں اسی پر عمل کرنا چاہیے۔۔۔:)

    ہم نے جملے کے آخر میں ایک اشارہ تو دیا تھا لیکن شاید آپ کی توجہ نہیں گئی۔(چہ نسبت خاک را بہ عالم پاک)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  19. الشفاء

    الشفاء لائبریرین

    مراسلے:
    2,949
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    سورۃ الحشر ۔ ۵۹

    ۷۸ ۔ سورۃ الحشر کی آیت نمبر ۱۸ میں اہل ایمان کو محاسبہ نفس کے بارے میں نہایت اہم ہدایت دی گئی ہے۔ ارشاد ہوتا ہے۔

    يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اتَّقُوا اللَّهَ وَلْتَنظُرْ نَفْسٌ مَّا قَدَّمَتْ لِغَدٍ وَاتَّقُوا اللَّهَ إِنَّ اللَّهَ خَبِيرٌ بِمَا تَعْمَلُونَO
    اے ایمان والو! تم اللہ سے ڈرتے رہو اور ہر شخص کو دیکھتے رہنا چاہئیے کہ اس نے کل (قیامت) کے لئے آگے کیا بھیجا ہے، اور تم اللہ سے ڈرتے رہو، بیشک اللہ اُن کاموں سے باخبر ہے جو تم کرتے ہوo
    سورۃ الحشر ، آیت نمبر ۱۸۔​

    اس آیت میں اہل ایمان کو نصیحت کی جا رہی ہے کہ اے فرزندان اسلام ! تقویٰ کو اپنا شعار بناؤ۔ ہوشیار ! ایسی راہ پر قدم نہ اٹھے جس سے تمہارے رب نے تمہیں روکا ہے اور اس کے احکام کی تعمیل میں کوتاہی نہ ہو۔ نیز یہ بھی تاکید فرمائی کہ ہر شخص اپنا محاسبہ کرتا رہے کہ اس نے اپنی عاقبت کے لیے کیا ذخیرہ تیار کیا ہے۔ جو شخص آج کی خوشیوں میں یوں کھو جائے کہ اسے کل کا ہوش نہ رہے وہ دانا نہیں، نادان ہے۔ تم ایسا نہ کرنا۔ تم اللہ تعالیٰ کے حبیب ﷺ کے غلام ہو، قیامت کے دن تمہاری شان نرالی ہونی چاہیے۔ تمہاری زندگی کے گرد نور کا ہالہ ہو اور اس نورانی ہالہ کے اندر تم چودھویں کے چاند کی طرح چمک رہے ہو تب لطف ہے۔ دوبارہ پھر تقویٰ کی تاکید فرمائی اور بتا دیا کہ تم جو کچھ کام کرتے ہو تمہارا خدا وند ذوالجلال اس سے خوب باخبر ہے۔۔۔(ضیاء القرآن)۔

    ۔۔۔​
     
    • زبردست زبردست × 3
  20. الشفاء

    الشفاء لائبریرین

    مراسلے:
    2,949
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    سُورة الْمُمْتَحِنَة ۔ ۶۰

    ۷۹ ۔ سُورة الْمُمْتَحِنَة کی پہلی آیت میں اللہ عزوجل حق کے منکروں کو اپنا اور اہل ایمان کا دشمن قرار دے رہا ہے اور مسلمانوں کو ان کی دوستی سے منع کیا جا رہا ہے۔ ارشاد ہوتا ہے۔

    يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا لَا تَتَّخِذُوا عَدُوِّي وَعَدُوَّكُمْ أَوْلِيَاءَ تُلْقُونَ إِلَيْهِم بِالْمَوَدَّةِ وَقَدْ كَفَرُوا بِمَا جَاءَكُم مِّنَ الْحَقِّ يُخْرِجُونَ الرَّسُولَ وَإِيَّاكُمْ أَن تُؤْمِنُوا بِاللَّهِ رَبِّكُمْ إِن كُنتُمْ خَرَجْتُمْ جِهَادًا فِي سَبِيلِي وَابْتِغَاءَ مَرْضَاتِي تُسِرُّونَ إِلَيْهِم بِالْمَوَدَّةِ وَأَنَا أَعْلَمُ بِمَا أَخْفَيْتُمْ وَمَا أَعْلَنتُمْ وَمَن يَفْعَلْهُ مِنكُمْ فَقَدْ ضَلَّ سَوَاءَ السَّبِيلِO
    اے ایمان والو! تم میرے اور اپنے دشمنوں کو دوست نہ بناؤ تم (اپنے) دوستی کے باعث اُن تک خبریں پہنچاتے ہو حالانکہ وہ اس حق کے ہی مُنکر ہیں جو تمہارے پاس آیا ہے، وہ رسول (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کو اور تم کو اس وجہ سے (تمہارے وطن سے) نکالتے ہیں کہ تم اللہ پر جو تمہارا پروردگار ہے، ایمان لے آئے ہو۔ اگر تم میری راہ میں جہاد کرنے اور میری رضا تلاش کرنے کے لئے نکلے ہو (تو پھر اُن سے دوستی نہ رکھو) تم اُن کی طرف دوستی کے خفیہ پیغام بھیجتے ہو حالانکہ میں خوب جانتا ہوں جو کچھ تم چھپاتے ہو اور جو کچھ تم آشکار کرتے ہو، اور جو شخص بھی تم میں سے یہ (حرکت) کرے سو وہ سیدھی راہ سے بھٹک گیا ہےo
    سُورة الْمُمْتَحِنَة ، آیت نمبر ۱ ۔​

    اگرچہ یہ آیت حضرت حاطب رضی اللہ عنہ کے اس خط کے واقعہ پر نازل ہوئی جو انہوں نے فتح مکہ سے قبل اہل مکہ کو ہشیار کرنے کے لیے لکھا تھا (جس کی تفصیل کتب تفسیر میں موجود ہے)۔ لیکن اس میں روئے سخن ساری ملت اسلامیہ کی طرف ہے۔ اس آیت کا خلاصہ یوں بیان کیا جا سکتا ہے کہ اے ایمان والو ! جو لوگ میرے دین کے دشمن ہیں اور جو لوگ تمہارے بھی بد خواہ ہیں ان کو اپنا دوست مت بناؤ۔ تم ان سے اپنی محبت کا اظہار کرتے ہو، حالانکہ وہ اس دین حق کا انکار کرتے ہیں جو تمہارے پاس اللہ کا رسول لے کر آیا ہے۔ اور ان کی عداوت کی اس سے بڑی روشن دلیل تمہیں اور کیا چاہیے کہ انہوں نے اللہ کے محبوب رسول ﷺ کو بھی مکہ چھوڑنے پر مجبور کر دیا اور تمہیں بھی جلا وطن کر دیا۔ تم نے ان کا کوئی قصور نہیں کیا تھا ۔ تم نے ان پر کوئی زیادتی نہیں کی تھی۔ ان کی نظروں میں تمہارا اللہ پر ایمان لانا ایک ایسا گناہ ہے جو قابل عفو نہیں۔ اگر تم اللہ کی راہ میں جہاد کے لیے میدان میں آئے ہو اور اس کی خوشنودی کے جویا ہو تو تمہیں اللہ تعالیٰ یہ حکم دیتا ہے کہ تم انہیں اپنا دوست مت بناؤ۔ تم میں سے بعض لوگ خفیہ طور پر کفار کو اپنی دوستی اور خیر خواہی کا یقین دلاتے ہیں۔کیا انہیں یہ بات بھول جاتی ہے کہ ان کا معاملہ اللہ تعالیٰ سے ہے اور اللہ تعالیٰ چھپی ہوئی اور ظاہر ہر چیز کو بخوبی جانتا ہے۔ قیامت تک آنے والے مسلمانوں میں سے اگر کسی نے ایسی غلطی کی تو وہ راہ راست سے بھٹک گیا اور اپنی منزل سے بہک گیا۔۔۔(ضیاء القرآن)۔

    ۔۔۔
     
    • زبردست زبردست × 2

اس صفحے کی تشہیر