نثری نظم کا عہدِ موجود

محمد خرم یاسین نے 'تعلیم و تدریس' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جون 30, 2016

  1. حسن محمود جماعتی

    حسن محمود جماعتی محفلین

    مراسلے:
    2,509
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    ویسے جاوید اختر بھارتی شاعر وہ بھی اس میں طبع آزمائی کر چکے ہیں۔ زندگی نہ ملے گی دوبارہ فلم میں ان کے صاحبزادے جو شاعری پڑھتے رہے وہ اسی نسل کی معلوم ہوتی ہے (شاید). تب میری اس سے واقفیت نہ تھی کہ یہ صنف بھی میدان سخن میں آ موجود ہے۔
     
  2. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,564
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    اس سے ایک بات تو ثابت ہوئی کہ کبھی ہمارے کاتب جو اپنی غلطیوں کی وجہ سے زیرِ عتاب رہتے تھے اب ان غلطیوں سے بری الذمہ ہو گئے، کچھ تو فائدہ ہو بلآخر اس "صنف" کا :)
     
    • پر مزاح پر مزاح × 4
    • زبردست زبردست × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  3. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    صالحین کرام۔
    نثری نظم قدیم صنف ہے۔ یونانی ہومر سے عجمی ہومر (بالمیک جی) تک کا سفر کیا جائے۔۔۔تو!
    کیلاش،تبت سے بابلی زندانیوں تک اس کے ثبوت ملتے ہیں۔پھر اسی دوران یرمیاہء نبی کے نوحوں کی موجودگی بہت کچھ سوچنے پہ مجبور کرتی ہے۔ اسی دور میں دریائے نیل سے دجلہ و فرات کے سنگم تک جائیں۔۔۔تو راستے میں کوہ بلقان،کوہ قبیس،کوہ سینا اور کوہ لبنان جیسی وادیاں آتی ہیں۔جو نثری نظم کے قدیمی ہونے کی شہادت دیتی ہیں۔غزل تو بہت عرصہ بعد وجود میں آئی۔
    صحیفہ ادریسء سے پتہ چلتا ہے۔۔۔کہ۔۔۔!
    نثری نظم بہت پرانی ہے۔لیکن اس کو مذہبی شدت پسندوں اور ضد،انا کے آنا پرستوں کا سامنا رہا۔قدیم فارسی آتش پرست گلیوں سے قدیم کنفیوشس بازاروں تک ۔۔۔۔ یہ موجود تھی۔۔۔اور آج موجود ہے۔
    لیکن اس کا تخلیقات شاعر کہلوانا پسند کرتا ہے ۔۔۔ تو یہ اسکا مسئلہ ہے۔
    میرے نزدیک نثری نظم لکھنے والا ناثم ہے۔۔۔یا تخلیقار ۔۔۔نثری نظم نگار ہے۔
    سچی نثری نظم لکھنے والا ۔۔۔۔ سچا ناثم۔۔۔۔خود شاعر کہلوانے کی بدعت نہیں کرے گا۔
     
    • زبردست زبردست × 1
  4. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    جناب عالی۔۔۔
    اس کو نثری نظم کہنا یا نثم کہنا ہی بہتر ہے۔
     
  5. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    نثری نظم۔

    جب بھی عشق والوں کا ذکر کرتا ہوں۔۔۔!
    سرخ سبز پرندوں کے ساتھ۔۔۔!
    اک سیاہ عمامہ باندھے علمدار بھی آتا ہے۔
    آہووان دشت میں چراغ روشن کرتے ہوئے۔۔۔!
    بھیگی آنکھوں کے خواب کی گرھیں کھول کر دکھاتا ہے۔
    محبتوں،چاہتوں کی پوٹلی سے زعفرانی پتیاں دکھاتے ہوئے۔۔۔!
    دست حنائی کے لمس سے۔۔۔!
    حنوط دھڑکنوں کو جگاتے ہوئے۔۔۔!
    گل مریم کا زخمی سر دکھاتا ہے۔۔۔بہت رلاتا ہے۔

    منصف ہاشمی۔۔۔فیصل آباد
     
    • زبردست زبردست × 1
  6. سید عاطف علی

    سید عاطف علی لائبریرین

    مراسلے:
    10,326
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    نثری نظم کا نام ایسا ہی ہے جیسے ۔
    اندھیری روشنی ۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 4
  7. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    995
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    مجھے یہ سمجھ نہیں آتا کہ اس کو "شاعری" قرار دینے پر اتنا اصرار کیوں کیا جاتا ہے؟؟؟ ارے بھئی اگر آپ نے کوئی بہت ہی توپ قسم کا خیال اچھے الفاظ میں قلم برداشتہ کر ہی لیا ہے تو اسے ادب شمار کروانے کے لئے اس پر زبردستی شاعری کا لیبل کاہے کو چسپاں کیا جاتا ہے؟؟؟
    بھئی نئی صنف ایجاد ہی کرنی ہے تو نثر میں کرلیجیے!!! نثری کی اصناف میں توسیع کیوں منجمد کردی گئی ہے؟؟؟
    مجھے تو اس کے علاوہ اور کوئی وجہ سمجھ نہیں آتی کہ شاعر ہونا، نثر نگار ہونے کے مقابلے میں شاید زیادہ گلیمرس ہوتا ہے! اس لئے سہولت پسندوں نے انگلی کٹوا کر شہیدوں میں نام لکھوانے کے لئے یہ شوشہ چھوڑ رکھا ہے، تاکہ عروض، قافیہ، صنائع و بدائع اور محاسن کلام سیکھنے پر محنت کئے بغیر بزعم خویش شاعر کہلائے جاسکیں.
    اس طرز عمل کے پس پردہ غالبا یہ (غلط) سوچ کارفرما ہے کہ نثر لکھنا تو بائیں ہاتھ کا کام ہے، یہ تو ہر کوئی لکھ سکتا ہے!
    جبکہ حقیقت شاید اس کے برعکس ہے. یہی وجہ ہے کہ آج تقریبا ہر محفل میں شاعروں کی تو بہتات ہے لیکن معیاری نثر لکھنے والے بہت کم رہ گئے ہیں.
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • متفق متفق × 1
  8. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    995
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    سیاہ عمامے والا عملدار (افسانچہ).
    جب بھی عشق والوں کا ذکر کرتا ہوں، سرخ سبز پرندوں کے ساتھ، تو اک سیاہ عمامہ باندھے علمدار بھی آتا ہے جو آہووان دشت میں چراغ روشن کرتے ہوئے بھیگی آنکھوں کے خواب کی گرھیں کھول کر دکھاتا ہے۔ محبتوں اور چاہتوں کی پوٹلی سے زعفرانی پتیاں دکھاتے ہوئے، دست حنائی کے لمس سے حنوط دھڑکنوں کو جگاتے ہوئے جب گل مریم کا زخمی سر دکھاتا ہے تو بہت رلاتا ہے۔

    ......................
    اس کتھا کو روایتی نثر کی ہئیت میں لکھنے سے کیا امر مانع ہے؟؟؟
    آخر ایک سیدھی سادی نثری عبارت کے جملوں کو "رینڈملی“ توڑ الگ الگ سطور میں لکھنے سے کون سی معنویت برامد ہوجاتی ہے؟؟؟
     
  9. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10


    لفظوں کی بنت اور معنوی آہنگ کی موجودگی میں ادبی شعور کا ہونا نثری نظم یا نثم کے زمرے میں آتا ہے۔ اب اگر لفظوں کی نفسیاتی حرکت مشخصانہ روانی کے داخلی اور خارجی پہلوؤں کا بھی خیال رکھا جائے۔۔۔تو وہی نثری نظم یا نثم کہلاتی ہے۔ جو خود کو ناثم نہیں کہلواتے۔۔۔شاعر ہونے پہ بضد ہیں۔ ان کے ہاں داخلی ادبی شعور اور معنوی اساطیری شعور کا فقدان ہوتا ہے۔ میرے نزدیک وہ صرف (ہم تم صنم۔۔۔مستفعلن) جیسے باٹ اور حرفوں کا وزن برابر کرنے والوں کا قریبی رشتۂ رفاقت نبھانے والا ہوتا ہے۔ کیونکہ اسے افاعیلی علائم کے زندانی ہونے شرف حاصل ہوتا ہے۔جو نرگسیت کی طرح ہوتے ہوئے۔۔۔پہلے تنقید نگار شیطان سے زیادہ خطرناک ہے۔
     
  10. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    9,898
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    ہماری رائے میں اب نثری نظم کی بحث بے معنی ہوگئی ہے اس لیے کہ یہ صنف ایجاد ہو نہیں رہی بلکہ ہوچکی ہے۔ یوں کہیے کہ تبدیلی آنہیں رہی بلکہ تبدیلی آچکی ہے۔

    منصف ہاشمی بھائی کو اردو محفل میں خوش آمدید۔

    ہم ذاتی طور پر نثری نظم سے سخت نالاں ہیں اور وجوہات کم و بیش وہی ہیں جو راحل بھائی نے بیان کی ہیں۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  11. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    9,898
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    ملاحظہ فرمائیے نثری نظم سے ہمارا انتقام!!!!!!

    غمِ روزگار

     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  12. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    995
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    ’’لفظوں کی بنت اور معنوی آہنگ‘‘ ماپنے کے وہ کون سے پیمانے ہیں جن پر کوئی تحریر پورا اترے تو وہ افسانہ، افسانچہ، انشائیہ، تمثیل سے ماورا ہوکر ’’نثم‘‘ کا پیرہن زیب تن کر لیتی ہے؟؟؟ کیا یہ اصول کہیں مدون کئے گئے ہیں؟؟؟
    ’’لفظوں کی نفسیاتی حرکت‘‘ کیا ہوتی ہے؟ اس کی جامع تعریف کہاں سے ملے گی؟؟
    میرؔ، غالبؔ، مومنؔ، داغؔ، ولیؔ، نسیمؔ، اصغرؔ، اخترؔ، اقبالؔ، فیضؔ، فرازؔ ۔۔۔ کسی نے خود کو ’’ناثم‘‘ نہیں کہلوایا بلکہ شاعر کہلائے جانے پر ہی بضد رہے! گویا یہ سب بھی ’’افاعیلی علائم کے زندانی‘‘ تھے جن کے یہاں ’’داخلی ادبی شعور‘‘ عنقا تھا؟؟؟
    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    باقی مراسلہ سمجھنے کے لئے فرہنگِ آصفیہ کا مطالعہ جاری ہے ۔۔۔ تاہم اصل سوال اب بھی جواب طلب ہے ۔۔۔ وہ یہ کہ جو کچھ بھی اس ’’نثم‘‘ میں بیان کرنے کی کوشش کی گئی ہے ۔۔۔ اس کو روایتی نثر کی ہئیت میں لکھنے سے کیا امر مانع ہوتا ہے؟؟؟ اور وہ ایسی کون سی معنویت ہے جو ان جملوں کی ’’رینڈم‘‘ تکسیر کے بغیر برآمد نہیں ہوسکتی؟؟؟

    جزاک اللہ،
     
    آخری تدوین: ‏اگست 11, 2020
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  13. سید عاطف علی

    سید عاطف علی لائبریرین

    مراسلے:
    10,326
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    واہ بہت اچھی نثری نظم کہی آپ نے ۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 5
  14. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    میرے

    میرے نزدیک اسے صرف نثر اس لئے نہیں کہا جاسکتا۔ کیونکہ یہ زبور کی ہیئت میں ہے۔
    اگر میں اسے تورات کے باب پیدائش کی ہیئت میں لکھتا۔۔۔تو یہ کہانی یا افسانہ ہوتا۔
    رہی بات شاعر کہلوانے کی۔۔۔تو آپ نے میرا جواب غور سے نہیں پڑھا۔ ورنہ فرہنگ آصفیہ کھنگالنے کی ضرورت نہ پڑتی۔۔۔خوش قسمت ہیں آپ ۔۔۔!
    جو آپ کے پاس فرہنگ آصفیہ موجود ہے۔میرے پاس تو فیروز اللغات بھی نہیں۔
    نثری نظم لکھنے والا شاعر نہیں کہلا سکتا۔
    میرا یہی نظریہ ہے۔
    نثری نظم لکھنے والا ۔۔۔ تخلیق کار،ناثم۔۔۔یا نثری نظم لکھنے والا کہلاتا ہے۔
    اور اگر نثم کے تناظر میں دیکھیں تو۔۔۔!
    نثری نظم لکھنے والا۔۔۔ناثم۔
    نثری نظم کی لائنیں۔ نثمیہ مصرعے
    نثری نظم کے حرفوں کا آہنگ۔۔۔نثمیہ حرف و معانی کی روانی کہلاتی ہے۔
    نثمیہ تعریف۔
    جن لفظوں کے سینے میں اساطیر دلفریبی سے دھڑکتی ہو۔۔۔وہ نثری نظم یا نثم کہلاتی ہے۔

    اس میں سماجی نفسیات کے ساتھ ادبی شعور ہونا لازمی ہے۔ بصورت دیگر وہ ایک پیرا گراف بن کر رہ جائے گا۔
     
    آخری تدوین: ‏اگست 11, 2020
    • مضحکہ خیز مضحکہ خیز × 1
  15. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    نثری نظم۔

    شعب ابو طالب کی طرف آتے ہوئے۔۔۔!
    سوسن و نسترن سے۔۔۔صندلی لہجے میں۔۔۔!
    لبنی کی رحل پر۔۔۔عشق کا صحیفہ پڑھتے ہوئے۔۔۔!
    وہ ہجر کی برچھی سینے سے نکال رہی تھی۔
    ڈوبتی سانسوں سے کردگار وفا کو بھی بلا رہی تھی۔

    منصف ہاشمی۔۔۔۔
     
  16. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    نثری نظم۔

    شعب ابو طالب کی طرف آتے ہوئے۔۔۔!
    سوسن و نسترن سے۔۔۔صندلی لہجے میں باتیں کرتے ہوئے۔۔۔!
    لبنی کی رحل پر۔۔۔عشق کا صحیفہ پڑھتے ہوئے۔۔۔!
    وہ ہجر کی برچھی سینے سے نکال رہی تھی۔
    ڈوبتی سانسوں سے کردگار وفا کو بھی بلا رہی تھی۔

    منصف ہاشمی۔۔۔۔
     
    • زبردست زبردست × 1
  17. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    995
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    مکرمی، اللہ آپ کے فن کو مزید ترقی عطا فرمائے.

    محفل میں ان نثر پاروں کے لئے باقاعدہ زمرہ مختص ہے، جہاں آپ کو یقینا ہم ذوق احباب مل جائیں گے.

    آپ کی نثری شاعری بحور سے آزاد
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • متفق متفق × 1
  18. منصف ہاشمی

    منصف ہاشمی محفلین

    مراسلے:
    10
    سلامتی
    سلامتی ہو سر۔
    ڈھونڈھ رہا ہوں۔ وہ بھی مل جائیں گے سر
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  19. محمد خرم یاسین

    محمد خرم یاسین محفلین

    مراسلے:
    2,151
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اس حوالے سے ایسے خیالات تائب حضرات کے رہے ہیں
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  20. محمد خرم یاسین

    محمد خرم یاسین محفلین

    مراسلے:
    2,151
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    آپ کا اس حوالے سے مطالعہ محدود معلوم ہوتا ہے۔بحث میں کبھی کسی کو کچھ نہیں ملتا کیوں کہ اس میں پہلے سے طے شدہ انداز میں کسی ایک پہلو کا دامن تھام لیا جاتا ہے یا میں نہ مانوں کی رٹ لگالی جاتی ہے۔ آپ اس حوالے سے افضال احمد سید کی نظموں کا مطالعہ کیجیے اور پھر بتائیے کہ ان کا جواز ہے یا نہیں۔ مزید یہ کہ آپ کو اس حوالے سے بہت سے سوالات کے جوابات کی تلاش میں مختلف جامعات سے شائع ہونے والے ادبی مجلات کا مطالعہ کیجیے اور ان دو کتب کا مطالعہ بھی ضرور کیجیے:
    urdu mein nasri nazm | Rekhta
    urdu mein nasri nazm ka aghaz-o-irtiqa | Rekhta
     

اس صفحے کی تشہیر