1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $413.00
    اعلان ختم کریں

مشاعرہ (احتجاج)

خرم شہزاد خرم نے 'بزم سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 27, 2009

  1. خرم شہزاد خرم

    خرم شہزاد خرم لائبریرین

    مراسلے:
    10,810
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    زلفی صاحب کے گھر ہم نے ایک ملاقات رکھی۔ جس کو مشاعرے کا نام دے دیا ۔ ہم نے کوئی مشاعرہ نہیں کرنا تھا بس بہار صاحب آ رہے تھے زلفی صاحب کے پاس تو ہم نے سوچا سب دوستوں کو دعوت دے دیتے ہیں ۔ کچھ کلام بھی ہو جائے گا اور ملاقات بھی۔
    وقت دن 12 بجے کا رکھا گیا اور میں 11 بجے زلفی صاحب کے گھر موجود تھا ۔ سردی کے دن تھے اس لے چھت پر بیٹھنے کا پروگرام بنایا گیا ۔ بہار صاحب (بہار صاحب پنجابی کے مشہور شاعرہ ہیں اس وقت ان کا پورا نام ذہن میں نہیں آ رہا ) 12 منٹ پہلے آ گے ۔ ان کے آنے سے پہلے میں نے سب تیاریاں مکمل کر لیں تھی۔ اب میں زلفی صاحب اور بہار صاحب باقی سب دوستوں کا انتظار کرنے لگے ۔ سب سے پہلے گل نازک صاحب کی کال آئی اور انھوں نے بتایا وہ کسی مجبوری کی وجہ سے نہیں آ سکتے ۔ اس کے بعد ایک ایک کر کے سب کا فون آیا اور اس دن اتفاق سے سب کو کوئی نا کوئی کام اجانک پڑ گیا ۔ مجھے جہاں بہار صاحب سے ملاقات پر خوشی ہو رہی تھی وہاں شرمندگی بھی ہو رہی تھی۔ زلفی صاحب تو پہلے ہی پرشان تھے۔ اتنے میں بہار صاحب نے گفتگو کا آغاز کیا ۔ اگر کوئی نہیں آ رہا تو کوئی بات نہیں ہم تین موجود ہیں انشاءاللہ اس ملاقات کو مشاعرہ ہی بنائیں گے۔ پھر انھوں نے ایک بات سنائی جو سن کر مجھے تو بہت خوشی ہوئی اور اب شرمندگی ختم ہو رہی تھی۔ یہ بات چلیئے بہار صاحب کی زبانی سنتے ہیں۔

    ہم نے بھی ایک ادبی تنظیم بناتھی ۔ خرم آپ کی طرح تھا میں اس وقت جب ہم نے تنظیم بنائی، میں تنظیم کا جنرل سیکٹری تھا ۔ ہم ہر ہفتے ایک تنقیدی نشیست رکھتے تھے۔ ایک ہوٹل کے ہال میں ،ہر جمعہ کی شام وہ حال ہمارے لیے خالی کیا جاتا تھا ۔ ایک جمعہ کو بہت تیز بارش ہو رہی تھی ۔ تنقیدی نشیست کا وقت ہونے والا تھا۔ میں نے برساتی پہنی اپنے کاغذات اٹھائے اور ہال کی طرف چل پڑا۔ میں اپنے وقت پر وہاں پہنچ گیا تھا ۔ بارش اس وقت بھی بہت تیز ہو رہی تھی ۔ مجھے امید تھے کوئی نا کوئی تو ضرور آئے گا ۔ لیکن ایک گھنٹہ گزرنے کے بعد بھی کوئی نا آیا ۔ میں وہاں اکیلا تھا۔ سامنے ایک ٹیبل تھا اس پر ایک جگ پڑا تھا میں نے ٹیبل کے ساتھ دو کرسیاں لگائی ایک صدر صاحب کے لیے ، ایک کلام پیش کرنے والے کےلیے اور ایک اپنے لیے ۔ جگ کو میں نے صدارت دی اور صدارت والی کرسی پر رکھ دیا ساتھ والی کرسی خالی رہنے دی۔ صدر صاحب کی اجازت تھے گزری نشیت کی کاروائی پڑھ کر سنائی ۔ موجودہ کاروائی کے بارے میں تفصیل سے لکھا۔ اور اس طرح تنقیدی نشست مکمل کی اور گھر آ گیا۔ آج تو پھر بھی ہم تین ہیں۔


    مشاعرہ​


    اعوذباللہ من الشیطن الرجیم
    بسم اللہ الرحمن الرحیم


    حمدِ باری تعالیٰ

    تصور سے بھی آگے تک درو دیوار کُھل جائیں
    میری آنکھوں پہ بھی یا رب تیرے اسرار کُھل جائیں

    میں تیری رحمتوں کے ہاتھ خود کو بیچنے لگوں
    مری تنہائیوں میں عشق کے بازار کُھل جائیں



    نعت

    نہ میرے سخن کو سخن کہو
    نہ مری نوا کو نوا کہو
    میری جاں کو صحنِ حرم کہو
    مرے دل کو غارِ حرا کہو

    میں لکھوں جو مدحِ شہہِ اُمم
    اور جبرائیل بنیں قلم
    میں ہوں ایک ذرہء بےدرہم
    مگر آفتابِ ثناء کہو


    حمد و نعت کے بعد تمام خواتین و حضرات کو میری جانب سے اور اردو محفل کی جانب سے السلام علیکم اور خوش آمدید۔ امید ہے آپ سب صحت اور ایمان کی بہتریں حالت میں ہونگے۔ اس مشاعرے کی خاص بات یہ ہے کہ اس مشاعرے میں نا تو صدرِ مشاعرہ ہونگے ، نا مہمانِ خصوصی ، یہاں صرف اور صرف نظامت کے لیے یہ خاکسار ہو گا اور مہمانِ اعزازی جناب محمد احمد صاحب ہونگے لیکن ان کو بھی کلام پیش کرنے کی اجازت نہیں ہوگی ۔ اور جب مہمانِ اعزازی کو کلام پیش کرنے اجازت نہیں ہوگی ، تو پھر کسی کو بھی نہیں ہو گی اس مشاعرے کی ایک خاص بات یہ ابھی شروع ہو گا اور انشاءاللہ ابھی ختم ہو جائے گا۔
    اور میرا خیال ہے اب مشاعرہ ختم کرنے کا وقت ہو گیا ہے انشاءاللہ آئندہ پھر کوئی مشاعرہ لے کر آپ کی خدمت میں حاضر ہونگے اللہ حافظ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 10
  2. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,602
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    تصور سے بھی آگے تک درو دیوار کُھل جائیں
    میری آنکھوں پہ بھی یا رب تیرے اسرار کُھل جائیں

    میں تیری رحمتوں کے ہاتھ خود کو بیچنے لگوں
    مری تنہائیوں میں عشق کے بازار کُھل جائیں


    سبحان اللہ خرم بھائی
    بہت عمدہ کلام ہے۔


    اور یہ طرزَ مشاعرہ بھی بہت خوب ہے بڑی آسانی سے جان چھوٹ گئی ورنہ شاعر حضرات کے آگے اگر شمعَ محفل رکھ دی جائے تو شمع پروانوں سمیت اللہ کو پیاری ہو جاتی ہے پر یہ حضرات نہیں جان چھوڑتے ۔ :grin:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  3. مغزل

    مغزل محفلین

    مراسلے:
    17,597
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    شاباش ، میرے یار، وہ کیا کہتے ہیں موئی انگریزی میں۔۔ ہاں۔۔ یاد آیا۔۔۔ ’’ گڈ گوئنگ ‘‘
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  4. سلیمان جاذب

    سلیمان جاذب محفلین

    مراسلے:
    553
    کیا بات ہے خرم بھائی
    بڑا شارٹ کٹ مارا ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  5. مغزل

    مغزل محفلین

    مراسلے:
    17,597
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    اور جناب ، اب اس مشاعرے کا باقائدہ اختتام کیا جاتا ہے ، اللہ حافظ،
    ( چائے پی کر جائے گا)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  6. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بہت شکریہ خرم بھائی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  7. مغزل

    مغزل محفلین

    مراسلے:
    17,597
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    (شمشاد انکل جلدی سے لڑی مقفل کردیں تاکہ کوئی اور نہ آجائے ) ہاہاہہاہا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    13,884
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    میں لکھوں جو مدحِ شہہِ اُمم
    پرِ جبرائیل بنیں قلم
    میں ہوں ایک ذرہء بےدرہم
    مگر آفتابِ ثناء کہو

    بہت خوب!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3

اس صفحے کی تشہیر