محسن نقوی زباں رکھتا ہوں لیکن چپ کھڑا ہوں ::: محسن نقوی

حسن محمود جماعتی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏نومبر 24, 2016

  1. حسن محمود جماعتی

    حسن محمود جماعتی محفلین

    مراسلے:
    2,504
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    زباں رکھتا ہوں لیکن چپ کھڑا ہوں
    میں آوازوں کے بن میں گھر گیا ہوں

    مرے گھر کا دریچہ پوچھتا ہے
    میں سارا دن کہاں پھرتا رہا ہوں

    مجھے میرے سوا سب لوگ سمجھیں
    میں اپنے آپ سے کم بولتا ہوں

    ستاروں سے حسد کی انتہا ہے
    میں قبروں پر چراغاں کر رہا ہوں

    سنبھل کر اب ہواؤں سے الجھنا
    میں تجھ سے پیشتر بجھنے لگا ہوں

    مری قربت سے کیوں خائف ہے دنیا
    سمندر ہوں میں خود میں گونجتا ہوں

    مجھے کب تک سمیٹے گا وہ محسنؔ
    میں اندر سے بہت ٹوٹا ہوا ہوں

    محسن نقوی​
     
    • زبردست زبردست × 1
  2. اکمل زیدی

    اکمل زیدی محفلین

    مراسلے:
    4,021
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Question
    بزمِ احباب میں حاصل نہ ہوا چین مجھے
    مطمئن دل ہے بہت ، جب سے الگ بیٹھا ہوں
    عمرکرتا ہوں بسر گوشہ ء تنہائی میں
    جب سے وہ روٹھ گئے ، تب سے الگ بیٹھا ہوں
    میرا انداز نصیر اہلِ جہاں سے ہے جدا
    سب میں شامل ہوں ، مگر سب سے الگ بیٹھا ہوں
     
    • زبردست زبردست × 1

اس صفحے کی تشہیر