1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $453.00
    اعلان ختم کریں

فارسی شاعری خوبصورت فارسی اشعار مع اردو ترجمہ

محمد وارث نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 7, 2008

  1. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    آن ماه را ز سوزِ خود آگاه چون کنم؟
    امکانِ دم زدن نبُوَد آه چون کنم؟

    (ظهیرالدین محمد بابُر)
    میں اُس [مثلِ] ماہ [محبوب] کو خود کے سوز سے آگاہ کیسے کروں؟۔۔۔ [یہاں] دم مارنے (یعنی سانس کھینچنے) کا [بھی] اِمکان نہیں ہے، میں آہ کیسے کروں؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  2. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    رُخ نمودی و به من مُردنم آسان کردی
    ورنه در فُرقتِ تو زیستنم مُشکِل بود

    (ظهیرالدین محمد بابُر)
    تم نے چہرہ دکھایا اور میرے مرنے کو میرے لیے آسان کر دیا۔۔۔ ورنہ تمہاری فُرقت میں میرا زندگی کرنا مُشکِل تھا۔
     
    آخری تدوین: ‏جون 9, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  3. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    (مصرع)
    حَرف ظرف آمد، در او معنی چو آب
    (مولانا جلال‌الدین رومی)
    حُروف ظَرف (برتن) کی مانند ہیں اور معنی اُس میں آب کی مانند ہے۔ یعنی جس طرح آب کو ظرف میں اُنڈیلتے ہیں، اُسی طرح معنی کو بھی قالبِ حُروف میں اُنڈیلا جاتا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  4. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,152
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    رُباعی از مولانا رُومی

    در راہِ طلب عاقل و دیوانہ یکیست
    در شیوۂ عشق خویش و بیگانہ یکیست
    آں را کہ شرابِ وصلِ جاناں دادند
    در مذہبِ اُو کعبہ و بُتخانہ یکیست


    (حقیقت کی) طلب کی راہ میں عقلمند اور دیوانہ ایک برابر ہیں، اور شیوۂ عشق میں اپنا اور بیگانہ ایک جیسے ہی ہیں۔ وہ کہ جسے محبوبِ حقیقی کے وصل کی شراب پلا دی گئی، اُس کے مذہب میں کعبہ اور بتخانہ ایک ہی ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  5. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    «سُلطان محمود غزنوی» کی سِتائش میں دو ابیات:
    به بزم اندرون آسمانِ وفاست
    به رزم اندرون تیزچنگ اژدهاست
    به تن ژَنده‌پیل و به جان جبرئیل
    به دست ابرِ بهمن، به دل رُودِ نیل
    (فردوسی طوسی)

    وہ بزم کے اندر آسمانِ وفا ہے۔۔۔ وہ رزم کے اندر تیز پنجے والا اژدَہا (ڈریگن) ہے۔۔۔ وہ تن کے لحاظ سے ہیبت‌ناک و عظیم‌الجُثّہ فِیل ہے اور جان و روح کے لحاظ سے جبرئیل ہے۔۔۔ وہ دستِ [جُود و سخاوت] کے لحاظ سے ابرِ [ماہِ] بہمن ہے اور [وُسعت و فراخیِ] دل کے لحاظ سے رُودِ (دریائے) نِیل ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  6. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    تا بردَرم به یادِ تواَش صد هزار بار
    هر لحظه صد هزار گریبانم آرزوست

    (پژواک)
    مجھے ہر لمحہ صد ہزار گریبانوں کی آرزو ہے تاکہ میں اُن کو تمہاری یاد میں صد ہزار بار پھاڑ ڈالوں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  7. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    هلاک می‌کُنَدم فُرقتِ تو، دانستم
    وگرنه رفتن ازین شهر می‌توانستم
    (ظهیرالدین محمد بابُر)

    میں جان گیا [تھا] کہ تمہاری فُرقت مجھ کو ہلاک کر دے گی۔۔۔ ورنہ میں اِس شہر سے چلے جانے پر قادِر تھا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  8. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    چون دِهد قاضی به دل رِشوت قرار
    کَی شِناسد ظالم از مظلومِ زار؟

    (مولانا جلال‌الدین رومی)
    جب قاضی [اپنے] دل میں رِشوت کو نصب کر لے تو پھر وہ ظالم اور مظلومِ زار کے درمیان کب فرق کرے گا؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  9. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    جنابِ «مسعود سعد سلمان لاهوری» اپنے ہم‌عصر شاعر «ابوالفَرَج رُونی» کی سِتائش میں کہتے ہیں:
    نازم بدان که هستم شاگردِ تو
    شادم بدان که هستی اُستادِ من

    (مسعود سعد سلمان لاهوری)
    میں اِس پر ناز کرتا ہوں کہ میں تمہارا شاگرد ہوں، اور میں اِس پر شاد ہوں کہ تم میرے اُستاد ہو۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  10. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    870
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ای مژدهٔ دیدارِ تو چون عید مبارک
    فردوس به چشمی‌که ترا دید مبارک
    (بیدل دهلوی)

    اے وہ کہ تیرے دیدار کی نوید عید کی مانند مبارک ہے۔ جنتِ فردوس نے جس چشم (آنکھ) سے تجھے دیکھا وہ مبارک ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  11. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    870
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ای بیخردان! غرهٔ اقبال مباشید!
    دولت نبود بر همه جاوید مبارک
    (بیدل دهلوی)

    اے نادانوں! (اپنی) نیک بختی سے فریب خوردہ و مغرور مت ہو! سعادت مندی ہر کسی پر ہمیشہ مبارک و بابرکت نہیں رہتی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  12. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    870
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    دیوانه‌ام امروز به پیشِ که بنالم
    ای کاش عدم بشنود آوازِ بعیدم
    (بیدل دهلوی)

    میں دیوانہ ہوں۔ امروز (آج) کس کے پیش گریہ و فریاد کروں؟ اے کاش! عدم میری آوازِ بعید سن لے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  13. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    شاید اِس مصرعے کا مفہوم یہ ہو:
    جس چشم نے تم کو دیکھا، اُس کو فردوس مُبارک [ہو]!
     
    • متفق متفق × 2
  14. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    870
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    یہ ترجمہ زیادہ قرینِ قیاس ہے
     
    آخری تدوین: ‏جون 12, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    چشمم که هر دم می‌کند غُسلی به خونابِ جگر
    با این طهارت نیستم زیبایِ دیدارِ شما
    (سلمان ساوَجی)

    میری چشم ہر لحظہ خونابِ جگر کے ساتھ اِک غُسل کرتی ہے۔۔۔ [لیکن] اِس طہارت کے باوجود مَیں آپ کے دیدار کا لائق و سزاوار نہیں ہوں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    اظهارِ عَجز پیشِ ستم‌پیشگان خطاست
    اشکِ کباب باعثِ طُغیانِ آتش است
    (صائب تبریزی)

    سِتم‌پیشہ افراد کے پیش میں عاجزی و ناتوانی کا اظہار خطا ہے کیونکہ اشکِ کباب آتش کی [مزید] طُغیانی کا باعث [بنتے] ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  17. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,152
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    عمرے بہ گردِ کوئے تو گشتم چو بیدلاں
    نے دل بہ دستم آمد و نے آرزوئے دل


    امیر خسرو

    ساری عمر میں نے بیدل (عاشق) لوگوں کی طرح تیرے کوچے میں گُھومتے ہوئے گزار دی، لیکن نہ ہی دل میرے ہاتھ میں آیا اور نہ ہی دل کی کوئی آرزو۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  18. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    870
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  19. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    «امیر نصر بن احمد سامانی» کی مدح میں دو ابیات:
    حاتَمِ طایی تویی اندر سخا
    رُستمِ دستان تویی اندر نبرد
    نی، که حاتَم نیست با جُودِ تو راد
    نی، که رُستم نیست در جنگِ تو مرد
    (رودکی سمرقندی)

    سخاوت کے اندر حاتَمِ طائی تم ہو۔۔۔ نبرْد کے اندر رُستم بن دستان تم ہو۔۔۔ نہیں نہیں! کہ حاتَم تمہارے جُود و سخا کے ہوتے ہوئے سخی نہیں ہے!۔۔۔ نہیں نہیں! کہ رُستم تمہاری جنگ میں (یعنی تمہارے ساتھ جنگ میں) مرد نہیں ہے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  20. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,378
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    «شاہ عبّاسِ دومِ صفوی» کی سِتائش میں ایک بیت:
    رسیده‌اند به دولت ازو و اجدادش
    چه بابُر و چه هُمایون چه خُسروِ توران
    (صائب تبریزی)

    خواہ بابُر ہو، خواہ ہُمایوں، یا خواہ پادشاہِ تُوران ہو، وہ اُس (شاہ عبّاسِ دومِ صفوی) کے اور اُس کے اجداد کے باعث اقبال‌مندی و اقتدار پر پہنچے ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3

اس صفحے کی تشہیر