فارسی شاعری خوبصورت فارسی اشعار مع اردو ترجمہ

محمد وارث نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 7, 2008

  1. عبدالصمدچیمہ

    عبدالصمدچیمہ لائبریرین

    مراسلے:
    92
    جھنڈا:
    Pakistan
    فارسی غزل بمعہ اردو ترجمہ از شہید محبت خواجہ قطب الدین بختیار کاکی اوشی رح

    اے جانِ جہاں آرزوئے روئے تو دارم
    در سر ہوسِ قامتِ دلجوئے تو دارم

    اے جان جہاں آپ کے چہرے کی زیارت کا مشتاق ہوں
    میری بزم خیال میں آپ کی سروقدی کا نشہ ہر وقت چھایا رہتا ہے

    در کعبہ و در صومعہ در دیروخرابات
    ہرجا کہ روم دیدہ دل سوئے تو دارم

    کعبہ ، کلیسا ، گرجا اور شراب خانے میں ہر جگہ
    جہاں بھی جاتا ہوں میرا دل آپ کی محبت میں سرشار رہتا ہے

    حاجی بہ طوافِ حرم کعبہ رود لیک
    من کعبہ مقصود سِر کوئے تو دارم

    حاجی حرم کعبہ کے طواف کے لئے جاتا ہے لیکن
    میرا قبلہ و کعبہ آپ کا سنگ آستاں ہے

    اندرصف طاعت چُوں بہ مسجد بہ نشستم
    دل مائل محراب دو ابروئے تو دارم

    جب بھی میں عبادت کی نیت سے مسجد میں بیٹھتا ہوں
    میرے دل کا رجوع آپ کے دونوں ابروؤں کی طرف ہوتا ہے

    ہرجا کہ رود قطبِ دیں آید بہرِتو باز
    چوں رشتہ دل بستہ بہر موئے تو دارم

    جہاں کہیں بھی قطب دیں جاتا ہے آپ ہی کے لئے جاتا ہے
    کیونکہ اُس کا دل تو آپ کی زلف سیاہ کا اسیر ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
  2. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    هر که ندارد سِرِشک و آهِ دمادم
    دعویِ عشق ار کند، گواه ندارد

    (محمد فضولی بغدادی)
    جو بھی شخص اشک اور پَے در پَے [نِکلنے والی] آہ نہیں رکھتا، وہ اگر عشق کا دعویٰ کرے تو گواہ نہیں رکھتا۔
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 18, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  3. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,908
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    عیش و غمِ تو تابعِ رسم است ورنہ چیست
    در عید خندہ و بہ محرم گریستن


    ابوالمعانی میرزا عبدالقادر بیدل

    تیرا عیش اور تیرے غم سب رسموں کے تابع ہیں ورنہ یہ کیا ہے (اور ایسا کیوں ہے) کہ عید کے دنوں میں ہنسنا اور محرم میں رونا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 7
    • زبردست زبردست × 1
  4. عبدالصمدچیمہ

    عبدالصمدچیمہ لائبریرین

    مراسلے:
    92
    جھنڈا:
    Pakistan
    بہت خوب۔ بیدلؒ کا کلام بہت ہی اچھا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    چو عاشق می‌شدم گفتم که بُردم گوهرِ مقصود
    ندانستم که این دریا چه موجِ خون‌فشان دارد

    (حافظ شیرازی)
    جب میں عاشق ہو رہا تھا تو میں نے کہا کہ میں نے گوہرِ مقصود پا لیا۔۔۔ میں نہیں جانتا تھا کہ یہ بحر کیسی موجِ خُوں فشاں رکھتا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  6. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    نگُفتمت که به یغما روَد دلت سعدی
    چو دل به عشق دِهی دل‌برانِ یغما را

    (سعدی شیرازی)
    اے سعدی! [کیا] میں نے نہیں کہا تھا کہ جب تم «یغما» کے دلبروں کو عشق میں دل دو گے تو تمہارا دل غارت و تاراج ہو جائے گا؟

    × یغْما = مشرقی تُرکستان کے ایک شہر کا نام، جو اپنے زیبا رُوؤں کے لیے فارسی شاعری میں مشہور رہا ہے۔
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  7. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    گرفتم آتشِ پنهان خبر نمی‌داری
    نگاه می‌نکنی آبِ چشمِ پیدا را

    (سعدی شیرازی)
    میں نے مان لیا کہ تم کو [میری] آتشِ پنہاں کی خبر نہیں ہے۔۔۔ [لیکن کیا] تم [میرے] ظاہر اشکِ چشم پر نگاہ نہیں کرتے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  8. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ای مُفتَخِر به طالعِ مسعودِ خویشتن
    تأثیرِ اخترانِ شما نیز بِگْذرَد

    (سیف فرغانی)
    اے اپنی خوش بختی پر فخر کرنے والے [شخص]!۔۔۔ تمہارے [مُبارک] ستاروں کا اثر بھی [بالآخر] گُذر جائے گا (زائل ہو جائے گا)۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  9. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    افغان-اُزبک شاعرہ «شفیقه یارقین 'دیباج'» کی ایک نثری نظم:
    بی‌تو هر شب
    کابوس‌ها به سُراغم می‌آیند
    دستِ مهربانت را بِفِرِست
    بیدارم کند.

    (شفیقه یارقین 'دیباج')

    تمہارے بغیر ہر شب
    کابُوس میری تلاش میں آتے ہیں
    اپنے دستِ مہربان کو بھیجو
    [تاکہ] مجھ کو بیدار کر دے۔

    × کابُوس = بُرا/ڈراؤنا خواب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  10. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    بادِ آسایشِ گیتی نزند بر دلِ ریش
    صُبحِ صادق ندمد تا شبِ یلدا نرود

    (سعدی شیرازی)
    جس وقت تک [ہجراں کی] شبِ یلدا نہ جائے، صُبحِ صادق طُلوع نہیں ہوتی [اور عاشق کے] دلِ زخمی پر دُنیا کی نسیمِ آسائش و آرامِش نہیں چلتی۔
    × شبِ یلدا = سال کی طویل ترین شب
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    سعدیا بار کَش و یار فراموش مکن
    مِهرِ وامق به جفا کردنِ عذرا نرود

    (سعدی شیرازی)
    اے سعدی! بارِ [غم] اُٹھاؤ [اور تحمُّل کرو]، اور یار کو فراموش مت کرو۔۔۔ عذرا کے جفا کرنے سے وامِق کی محبّت نہیں چلی جاتی۔
    × وامِق، عذرا کے عاشق کا نام تھا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  12. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    اگر تو فارغی از حالِ دوستان یارا
    فراغت از تو مُیسّر نمی‌شود ما را

    (سعدی شیرازی)
    اے یار! اگر تم دوستوں کے حال سے فارغ و بے نیاز ہو، [تو] ہم کو [کسی لمحہ] تم سے فراغت مُیسّر نہیں ہوتی۔
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 21, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  13. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    بِیا که وقتِ بهار است تا من و تو به هم
    به دیگران بِگُذاریم باغ و صحرا را

    (سعدی شیرازی)
    آ جاؤ کہ وقتِ بہار ہے تاکہ ہم اور تم باہم [مِل کر] باغ و صحرا کو دیگروں کے لیے چھوڑ دیں (یا دیگروں کے سُپُرد کر دیں)۔
    (یعنی سعدی کے نزدیک موسمِ بہار میں باغ و صحرا میں سَیر و تفریح کی بجائے معشوق کے ساتھ ہم نشینی بہتر ہے۔ وہ گردشِ باغ و بوستان پر محفلِ اُنس کو، اور لذّتِ بہارِ دُنیا پر لذّتِ مُصاحبت کو ترجیح دیتا ہے۔ جس جگہ سعدی کا یار ہو، وہاں خود ہی باغ ظاہر ہو جاتا ہے، لہٰذا سعدی کو بہار کے وقت باغ میں جانے کی حاجت محسوس نہیں ہوتی۔)
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 22, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  14. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    به جایِ سروِ بلند ایستاده بر لبِ جُوی
    چرا نظر نکنی یارِ سرْوبالا را

    (سعدی شیرازی)
    لبِ جُو (یعنی نہر کے کنارے) پر کھڑے سرْوِ بُلند کی بجائے تم یارِ سرْو قامت پر نظر کیوں نہیں کرتے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  15. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    924
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    من نظر بازگرفتن نتوانم همه عمر
    از من ای خسروِ خوبان تو نظر بازمگیر
    (سعدی شیرازی)

    میں ساری عمر آنکھیں بند نہیں کرسکتا۔ اے پادشاہِ خوباں! تو مجھ سے آنکھیں بند نہ کر۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    نخواهی که باشد دلت دردمند
    دلِ دردمندان برآور ز بند

    (سعدی شیرازی)
    [اگر] تم نہیں چاہتے کہ تمہارا دل دردمند ہو تو دردمندوں کے دل کو بندِ [درد] سے خَلاصی دلاؤ۔
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 22, 2018
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  17. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    مراست خانه بیابان و دل ز خون دریا
    تو عشق بین که مرا میرِ بحر و بر دارد

    (قاآنی شیرازی)
    میرا گھر بیابان ہے، اور میرا دل خُون سے بحر [ہو گیا] ہے۔۔۔ تم عشق کو دیکھو کہ وہ مجھ کو میرِ بحر و بر رکھتا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  18. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    مَیِ دیرینه و معشوقِ جوان چیزی نیست
    پیشِ صاحب‌نظران حور و جِنان چیزی نیست

    (علّامه اقبال لاهوری)
    صاحب نظر افراد کے پیش میں شرابِ کُہنہ، معشوقِ جواں، اور حُور و جِناں کوئی چیز نہیں ہے (ہِیچ ہے)۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  19. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    مرا آشفته می‌دارد سرِ زلفِ دل‌آرامی
    چو بلبل می‌کنم زاری ز سودایِ گل‌اندامی

    (عبدالمجید تبریزی)
    ایک [محبوبِ] دل آرام کی زُلف کا سِرا مجھ کو آشُفتہ رکھتا ہے۔۔۔ میں ایک [محبوبِ] گُل اندام کے عشق و جنوں کے باعث بُلبُل کی مانند [نالہ و] زاری کرتا ہوں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  20. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    حمدیہ بیت:
    ندانم نعمتت را برشُمارم
    ولیکن از تو دارم هر چه دارم

    (عبدالمجید تبریزی)
    میں تمہاری [عطا کردہ] نعمتوں کو شُمار نہیں کر سکتا، لیکن میں جو کچھ بھی رکھتا ہوں، وہ تم [ہی] سے رکھتا ہوں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2

اس صفحے کی تشہیر