مجذوب ادا شناس ترا بےزباں نہیں ہوتا (خواجہ عزیز الحسن مجذؔوب)

نیرنگ خیال نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اکتوبر 5, 2016

  1. نیرنگ خیال

    نیرنگ خیال لائبریرین

    مراسلے:
    17,935
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    ادا شناس ترا بےزباں نہیں ہوتا
    کہے وہ کس سے کوئی نکتہ داں نہیں ہوتا

    سب ایک رنگ میں ہیں مے کدے کے خورد و کلاں
    یہاں تفاوت پیر و جواں نہیں ہوتا

    قمار عشق میں سب کچھ گنوا دیا میں نے
    امید نفع میں خوف زیاں نہیں ہوتا

    سہم رہا ہوں میں اے اہل قبر بتلا دو
    زمیں تلے تو کوئی آسماں نہیں ہوتا

    وہ محتسب ہو کہ واعظ وہ فلسفی ہو کہ شیخ
    کسی سے بند ترا راز داں نہیں ہوتا

    وہ سب کے سامنے اس سادگی سے بیٹھے ہیں
    کہ دل چرانے کا ان پر گماں نہیں ہوتا

    جو آپ چاہیں کہ لے لیں کسی کا مفت میں دل
    تو یہ معاملہ یوں مہرباں نہیں ہوتا

    جہاں فریب ہو مجذوبؔ یہ تری صورت
    بتوں کے عشق کا تجھ پر گماں نہیں ہوتا

    خواجہ عزیز الحسن مجذؔوب​
     
    • زبردست زبردست × 6
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  2. غدیر زھرا

    غدیر زھرا لائبریرین

    مراسلے:
    3,150
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Devilish
    ہر شعر لاجواب..اتنی اچھی غزل کی شراکت پر بہت شکریہ نین بھیا :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • متفق متفق × 1
  3. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,045
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    لاجواب۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  4. طارق شاہ

    طارق شاہ محفلین

    مراسلے:
    10,642
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm


    ادا شناس تِرا بےزباں نہیں ہوتا !
    کہے وہ کِس سے، کوئی نکتہ داں نہیں ہوتا

    سب ایک رنگ میں ہیں میکدے کے خُرد و کَلاں
    یہاں تفاوتِ پِیر و جَواں نہیں ہوتا

    قُمارِعِشق میں سب کُچھ گنوا دِیا میں نے
    اُمیدِ نفع میں، خوفِ زِیاں نہیں ہوتا

    سہم رہا ہُوں میں، اے اہلِ قبر بتلا دو !
    زمِیں تلے تو کوئی آسماں نہیں ہوتا

    وہ محتسب ہو کہ واعظ ، وہ فلسفی ہو کہ شیخ
    کسی سے بند تِرا راز داں نہیں ہوتا

    وہ سب کے سامنے اِس سادگی سے بیٹھے ہیں !
    کہ دِل چُرانے کا، اُن پر گُماں نہیں ہوتا

    جو آپ چاہیں ،کہ لے لیں کسی کا مُفت میں دِل
    تو یہ مُعاملہ ، یوُں مہرباں نہیں ہوتا

    جہاں فریب ہے مجذوبؔ ! یہ تِری صُورت
    بُتوں کے عِشق کا، تجھ پر گُماں نہیں ہوتا

    خواجہ عزیز الحسن مجذؔوب

    بہت خوب جناب ، بہت ہی اچھا انتخاب !
    بہت سی داد ! اور شیئر کرنے پر تشکّر
    :):)
     
    آخری تدوین: ‏اکتوبر 6, 2016
    • زبردست زبردست × 3
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    22,251
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    خوبصورت غزل نین بھائی!

    خوش رہیے۔ :) :) :)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 2
    • متفق متفق × 1
  6. ڈاکٹرعامر شہزاد

    ڈاکٹرعامر شہزاد معطل

    مراسلے:
    2,162
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بہت خوبصورت غزل ہے ۔۔۔ شیئرنگ کے لیے شکریہ
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  7. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,398
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    زبردست انتخاب
    شراکت کا شکریہ
    سلامت رہین :)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  8. نیرنگ خیال

    نیرنگ خیال لائبریرین

    مراسلے:
    17,935
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    شکریہ غدیر۔۔۔ :)

    انتخاب کو پسند کرنے پر شکرگزار ہوں وارث بھائی

    شاہ صاحب بہت شکرگزار ہوں۔ جزاک اللہ

    شکریہ احمد بھائی :)

    شکریہ ڈاکٹر صیب۔۔۔ :)

    شکریہ شاہ سرکار۔۔۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 3
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر