آئیں گپ شپ کریں

گُلِ یاسمیں

لائبریرین
عبدالقدیر 786 بھائی کو وقت نے ایک بار پھر دولہا بنا دیا ۔

انہیں نہ بنایا "جو" بننا چاہ رہے ہیں ۔

صحرا تو بوند کو بھی ترستا دکھائی دے
پانی ، سمندروں پہ برستا دکھائی دے
ان کے لئے تو اس کے سوا کیا کہئیے

جا اپنی حسرتوں پہ آنسو بہا کے سو جا
 

وسیم

محفلین
چلیں ایک تیر ہی کم ہوجائے گا جو ہماری طرف آیا۔
تیر چلانے کے بعد ہم نے رخصت ہونا بھائی کمین گاہ سے۔
گنتی پوری رکھئیے

سنگ ہیں ناوک دشنام ہیں رسوائی ہے
یہ ترے شہر کا انداز پذیرائی ہے

ایک پتھر ادھر آیا ہے تو اس سوچ میں ہوں
میری اس شہر میں کس کس سے شناسائی ہے
 

وسیم

محفلین
سب آپ کو دولہا میاں کے نام سے یاد کر رہے تھے۔ ہم نے سوچا کہ بھائی کی شادی ہو رہی ہے تو آ گئے واگ پھڑائی لینے۔
واگ پھڑائی وہ نیگ ہے جب دولہا گھوڑے پر سوار ہوتا ہے بارات لے جانے کو تو بہنیں راستہ روکتی ہیں ، پھر دولہا بھائی اپنے عمر قید پانے کی جلدی میں جانے کے لئے جو نیگ بہنوں کو دیتا ہے اسے کہتے ہیں واگ پھڑائی۔ غلط ہو تو کوئی تصحیح کر دیں، ہمیں تو یہی پتہ تھا۔

ہن او باتاں کتھے ریاں

ہن تے اسٹیرنگ پھڑائی دا دور اے۔۔۔
 

وسیم

محفلین
آداب عرض ہے
اور شہر کا اندازِ پذیرائی اپنانا ہم پر فرض ہے۔ اپنی ڈیڑھ اینٹ کی مسجد تھوڑی بنانی ہم نے۔ بس قدیر بھائی کے سامنے سے ہٹئیے آپ۔ ہمیں نشانہ تاکنے دیجئیے۔

ارے یہ عبدالقدیر بھائی ہیں،

اور ویسے بھی ابھی شوال چل رہا ہے

:ROFLMAO:

دو مہینے ٹہریں، صبر صبر، تحمل تحمل، تب تک آئینے پہ مشق اندازی کرتی رہیں، وہ کیا کہتے ہیں آئی ٹی کی زبان میں رئیل ٹائم ٹیسٹنگ

;):sneaky:
 

گُلِ یاسمیں

لائبریرین
ارے یہ عبدالقدیر بھائی ہیں،

اور ویسے بھی ابھی شوال چل رہا ہے

:ROFLMAO:

دو مہینے ٹہریں، صبر صبر، تحمل تحمل، تب تک آئینے پہ مشق اندازی کرتی رہیں، وہ کیا کہتے ہیں آئی ٹی کی زبان میں رئیل ٹائم ٹیسٹنگ

;):sneaky:
آئینے ہمارے سامنے آتے ہی دھندلا سے جاتے ہیں اور بزبان خاموشی شکوہ کرتے ہیں کہ اور تابِ نظارہ نہیں اب
ایسے میں ہم بے چارے آئینوں پر دہرا ستم کیسے ڈھائیں۔
 

وسیم

محفلین
ہماری شادی تو ہوگئی ہے اور نیگ وغیرہ بھی دے چکا ہوں آپ دیر سے پہنچیں

ارے پہنچی تو ہیں نا۔ پانچ نمبر تو استاد صفائی کے بھی دے ہی دیتے ہیں۔ یہ مجھے لگتا ہے اڑتی اڑتی آ رہی تھیں کہ راستے میں موٹروے پہ لگا بورڈ پڑھ بیٹھیں

دیر سے پہنچنا نا پہنچنے سے بہتر ہے

بس پھر قانون کے ہاتھوں سے بچنے کے چکر میں واگ پھڑائی ہاتھوں سے نکل گئی
 

وسیم

محفلین
آئینے ہمارے سامنے آتے ہی دھندلا سے جاتے ہیں اور بزبان خاموشی شکوہ کرتے ہیں کہ اور تابِ نظارہ نہیں اب
ایسے میں ہم بے چارے آئینوں پر دہرا ستم کیسے ڈھائیں۔

چلیں کچھ نہیں ہوتا، وقت کے ساتھ ساتھ اسے عادت ہو جائے گی۔
 

گُلِ یاسمیں

لائبریرین
ارے پہنچی تو ہیں نا۔ پانچ نمبر تو استاد صفائی کے بھی دے ہی دیتے ہیں۔ یہ مجھے لگتا ہے اڑتی اڑتی آ رہی تھیں کہ راستے میں موٹروے پہ لگا بورڈ پڑھ بیٹھیں

دیر سے پہنچنا نا پہنچنے سے بہتر ہے

بس پھر قانون کے ہاتھوں سے بچنے کے چکر میں واگ پھڑائی ہاتھوں سے نکل گئی
یہ ہواؤں میں کون سا موٹر وے ہوتا ہے جہاں بورڈ بھی لگا ہوتا ہے؟
 
Top