Betrayal، Survival And Phoenix in Apocalypse

صابرہ امین

لائبریرین
Dear Mehfileen

Betrayal in any form is considered an unbearable pain. However, a moment comes when you learn to cope with this agony and find yourself much more powerful than ever.
1.jpg


2.jpg


3.jpg


4.jpg


1

Your betrayal was like an apocalypse,
Which wrote for me a horrible script,
And printed everlasting marks on my soul,
On my life, it took a toll.
One day it will all be over,

An unseen hand patted on my shoulder.
Your betrayal was like thunder.
Surely my biggest blunder,
Was loving you wholeheartedly,
And getting hurt unfairly.
One day it will all be over,

An unseen hand patted on my shoulder.

Your betrayal was like a curse,
Nothing could hurt my inner-self worse,
I burned myself in a heap of flames,
Before being born again

Only to regenerate myself into a new being,
I gladly took salvation in freeing,
This phoenix will write a different history,
Where you will be a dark mystery.

One day it will all be over,
An unseen hand patted on my shoulder.

After taking many turns,
After taking making twists,
My life has begun anew,
And only God and I know what I have gone through.

Finally, and for good, all is now over,
I kissed the unseen hand, for this changeover.

As every cloud has a silver lining,
I’m ready to start afresh,
My endeavors to cope with,
Will help me get refreshed.

Eventually it has happened,
By the grace of God,
instead of being transfixed,
I have survived the apocalypse.

By Sabra Amin
https://www.urduweb.org/mehfil/threads/صابرہ-امین-کی-انگریزی-نظمیں.116977/


https://www.urduweb.org/mehfil/threads/صابرہ-امین-کی-انگریزی-نظموں-پر-تبصرہ-جات.116916/page-11
 
آخری تدوین:

Khursheed

محفلین
میرا خیال ہے کہ دھوکہ بندا تب کھاتا ہے جب کسی سے بہت زیادہ امیدیں وابستہ کر لیتا ہے اور جب وہ عام سا بندہ جسے اس نے خاص سمجھ رکھا ہوتا ہے امیدیں توڑتا ہے تو امید رکھنے والے کابہت زیادہ دل دکھتا ہے حالانکہ بطور مسلمان ہمیں حکم ہے کہ امید صرف اللہ سے رکھو حقیقی محبت کے لائق صرف وہی ہے اور جب یہ بات بندے کی سمجھ میں آجاتی ہے تو وہ مظبوط ہو جاتا ہے اور اس کے دل سے ڈر نکل جاتا ہے اور تباہی کی بجائے نئی زندگی کی طرف لوٹتا ہے- اور کندھے پہ ہاتھ رکھ کے کوئی شاید یہی سمجھانے کی کوشش کررہا ہے
خواجہ غلام فرید کی کافی ہے
دل درد توں ماندی نہ تھی دردِ جگر اِیویں ہوندن --- ویسن گذر اصلوں نہ ڈر ظلم و قہر ایویں ہوندن
اے دل درد سے نہ گھبرا دل کے درد تو بس ایسے ہی ہوتے ہیں اور ایک دن ختم ہو جاتے ہیں-یہ ظلم اور قہر بھی ایک دن چلے جائیں گے ان سے پریشان ہونے کی ضرورت نہیں
Well done! You have once again prove your eloquence in expressing inner feelings
 

صابرہ امین

لائبریرین
میرا خیال ہے کہ دھوکہ بندا تب کھاتا ہے جب کسی سے بہت زیادہ امیدیں وابستہ کر لیتا ہے اور جب وہ عام سا بندہ جسے اس نے خاص سمجھ رکھا ہوتا ہے امیدیں توڑتا ہے تو امید رکھنے والے کابہت زیادہ دل دکھتا ہے حالانکہ بطور مسلمان ہمیں حکم ہے کہ امید صرف اللہ سے رکھو حقیقی محبت کے لائق صرف وہی ہے اور جب یہ بات بندے کی سمجھ میں آجاتی ہے تو وہ مظبوط ہو جاتا ہے اور اس کے دل سے ڈر نکل جاتا ہے اور تباہی کی بجائے نئی زندگی کی طرف لوٹتا ہے- اور کندھے پہ ہاتھ رکھ کے کوئی شاید یہی سمجھانے کی کوشش کررہا ہے
خواجہ غلام فرید کی کافی ہے
دل درد توں ماندی نہ تھی دردِ جگر اِیویں ہوندن --- ویسن گذر اصلوں نہ ڈر ظلم و قہر ایویں ہوندن
اے دل درد سے نہ گھبرا دل کے درد تو بس ایسے ہی ہوتے ہیں اور ایک دن ختم ہو جاتے ہیں-یہ ظلم اور قہر بھی ایک دن چلے جائیں گے ان سے پریشان ہونے کی ضرورت نہیں
Well done! You have once again prove your eloquence in expressing inner feelings
عام انسان بےچارہ امیدیں لگاہی لیتا ہے۔ ہم نے کچھ سہیلیوں کو بےوفائی کا شکار ہو کر ٹوٹتے اور پھر پہلے سے مضبوط ہوتے دیکھا۔ اللہ کسی پر اس کی برداشت سے زیادہ بوجھ کب ڈالتا ہے بھلا ۔ بس یہ سب سوچ کے لکھ ڈالا ۔ ہمارے چند الفاظ کے عیوض کتنے خوبصورت خیالات اور نظریات سننے کو ملے ۔ بے حد شکریہ جناب ۔
:redrose::redrose::redrose: Thank you so very much for your motivational feedback. I will remain indebted to you for this. Be blessed​
 

یاسر شاہ

محفلین
بہت خوب ما شاء اللہ حوصلے بڑھاتی، ہمت بند ھاتی، آپ کی مثبت سوچ کی ترجمان ایک اچھی نظم ہے۔
خلیل بھائی کی توجہ اس طرف مبذول کراتے ہیں کہ وہ بھی رائے دیں ۔ان کی انگلش بھی خوب ہے۔

محمد خلیل الرحمٰن
 

صابرہ امین

لائبریرین
بہت خوب ما شاء اللہ حوصلے بڑھاتی، ہمت بند ھاتی، آپ کی مثبت سوچ کی ترجمان ایک اچھی نظم ہے۔
خلیل بھائی کی توجہ اس طرف مبذول کراتے ہیں کہ وہ بھی رائے دیں ۔ان کی انگلش بھی خوب ہے۔

محمد خلیل الرحمٰن
آپ کا بے حد شکریہ ۔ آپ کے الفاظ بلاشبہ حوصلہ بڑھاتے ہیں ۔ خلیل بھائی کو سچ میں ہم نے بھی بہت یاد کیا اور کچھ اور بھی بڑے قابل لوگوں کو۔ بس ان کی مصروفیت کا سوچ کر ٹیگ نہیں کیا ۔امید ہے دل میں کہ ان کے پاس وقت ہو گا تو ضرور آئیں گے ۔ محمد خلیل الرحمٰن بھائی یاسر بھائی نے ہمارے دل کی بات کی ہے ۔
 
آخری تدوین:

سیما علی

لائبریرین
The saddest thing about Betrayal is that it never comes from enemies ,if you’re not my friend behind my back ,don’t pretend to be my friend on my face.
Without experiencing betrayal You cannot feel the exact
pain !!!!!!!!
Very …,,,,
Beautifully composed in
appropriate words,With lots of love and prayers.
 

صابرہ امین

لائبریرین
The saddest thing about Betrayal is that it never comes from enemies ,if you’re not my friend behind my back ,don’t pretend to be my friend on my face.
Without experiencing betrayal You cannot feel the exact
pain !!!!!!!!
Very …,,,,
Beautifully composed in
appropriate words,With lots of love and prayers.​

Thank you so much Seema Aapa for taking out time to read and comment. It's true that we are often deceived by our close friends or near ones and it tears us apart. If a foe does so, we don't take it to heart as it is always expected from them. May God save us from being shattered by this pain. Aameen​
 

محمد عبدالرؤوف

لائبریرین
بہت خوب اچھی نظم ہے۔۔۔ مثبت اور احساسات سے بھر پور
مجھے ایسے لگتا ہے کہ انگریزی لکھتے ہوئے آپ کی سوچ کسی اور زاویئے پر ہوتی اور اردو میں کسی اور زاویئے پر۔۔ کیا یہ محض میرا خیال ہے یا اس میں کوئی حقیقت بھی ہے
 

صابرہ امین

لائبریرین
بہت خوب اچھی نظم ہے۔۔۔ مثبت اور احساسات سے بھر پور
مجھے ایسے لگتا ہے کہ انگریزی لکھتے ہوئے آپ کی سوچ کسی اور زاویئے پر ہوتی اور اردو میں کسی اور زاویئے پر۔۔ کیا یہ محض میرا خیال ہے یا اس میں کوئی حقیقت بھی ہے
بہت شکریہ بھائی ۔ زاویہءنگاہ کا تو پتہ نہیں ہاں یہ ضرور ہے کہ اردو میں احساسات سے زیادہ قافیہ اور ردیف کے بارے میں سوچنا پڑتا ہے جبکہ انگریزی میں جو دل میں آئے وہ لکھ دیتی ہوں ۔
 
بہت خوب ما شاء اللہ حوصلے بڑھاتی، ہمت بند ھاتی، آپ کی مثبت سوچ کی ترجمان ایک اچھی نظم ہے۔
خلیل بھائی کی توجہ اس طرف مبذول کراتے ہیں کہ وہ بھی رائے دیں ۔ان کی انگلش بھی خوب ہے۔

محمد خلیل الرحمٰن

آپ کا بے حد شکریہ ۔ آپ کے الفاظ بلاشبہ حوصلہ بڑھاتے ہیں ۔ خلیل بھائی کو سچ میں ہم نے بھی بہت یاد کیا اور کچھ اور بھی بڑے قابل لوگوں کو۔ بس ان کی مصروفیت کا سوچ کر ٹیگ نہیں کیا ۔امید ہے دل میں کہ ان کے پاس وقت ہو گا تو ضرور آئیں گے ۔ محمد خلیل الرحمٰن بھائی یاسر بھائی نے ہمارے دل کی بات کی ہے ۔

یاسر بھائی! آپ کی اور صابرہ بٹیا کی فرمائش نوٹ کرلی ہے۔ آج رات مشاعرے کے بعد ڈکشنری کھول کر بیٹھیں گے تب ہی اپنی رائے دے پائیں گے۔
 
پڑھنا شروع کیا تو پڑھتے ہی چلے گئے۔ ماشاءاللہ بہت خوبصورت انداز میں ایک کیتھارسس کا احوال بیان کیا ہے۔ جس طرح فینکس اپنے آنسوؤں سے لگائی آگ میں جل کر راکھ ہو جانے کے بعد ایک نیا جنم پاتا ہے، اسی طرح باہمت لوگ اپنے غم میں گھٹ گھٹ کر اپنے آپ کو تباہی نہیں کرلیتے بلکہ اپنے غموں کو ظاہر کرکے اپنے اندر سے حوصلہ پاتے ہیں اور اس ایپوکلپس سے بھی فاتح بن کر ابھرتے ہیں۔ ہم تو یہی سمجھ پائے!
بہت خوبصورت نظم! بہت سی داد قبول کیجئے۔
 

نور وجدان

لائبریرین
Dear Mehfileen

Betrayal in any form is considered an unbearable pain. However, a moment comes when you learn to cope with this agony and find yourself much more powerful than ever.
1.jpg


2.jpg


3.jpg


4.jpg


1

Your betrayal was like an apocalypse,
Which wrote for me a horrible script,
And printed everlasting marks on my soul,
On my life, it took a toll.
One day it will all be over,

An unseen hand patted on my shoulder.
Your betrayal was like thunder.
Surely my biggest blunder,
Was loving you wholeheartedly,
And getting hurt unfairly.
One day it will all be over,

An unseen hand patted on my shoulder.

Your betrayal was like a curse,
Nothing could hurt my inner-self worse,
I burned myself in a heap of flames,
Before being born again

Only to regenerate myself into a new being,
I gladly took salvation in freeing,
This phoenix will write a different history,
Where you will be a dark mystery.

One day it will all be over,
An unseen hand patted on my shoulder.

After taking many turns,
After taking making twists,
My life has begun anew,
And only God and I know what I have gone through.

Finally, and for good, all is now over,
I kissed the unseen hand, for this changeover.

As every cloud has a silver lining,
I’m ready to start afresh,
My endeavors to cope with,
Will help me get refreshed.

Eventually it has happened,
By the grace of God,
instead of being transfixed,
I have survived the apocalypse.

By Sabra Amin

زبردست!
 

صابرہ امین

لائبریرین
پڑھنا شروع کیا تو پڑھتے ہی چلے گئے۔ ماشاءاللہ بہت خوبصورت انداز میں ایک کیتھارسس کا احوال بیان کیا ہے۔ جس طرح فینکس اپنے آنسوؤں سے لگائی آگ میں جل کر راکھ ہو جانے کے بعد ایک نیا جنم پاتا ہے، اسی طرح باہمت لوگ اپنے غم میں گھٹ گھٹ کر اپنے آپ کو تباہی نہیں کرلیتے بلکہ اپنے غموں کو ظاہر کرکے اپنے اندر سے حوصلہ پاتے ہیں اور اس ایپوکلپس سے بھی فاتح بن کر ابھرتے ہیں۔ ہم تو یہی سمجھ پائے!
بہت خوبصورت نظم! بہت سی داد قبول کیجئے۔
جی بالکل ایسا ہی ہے ۔ آپ کے خوبصورت الفاظ کا شکریہ ۔ یہ ہمیشہ میری یادوں کے توشہ خانہ میں محفوظ رہیں گے ۔
 
Top