1. اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں فراخدلانہ تعاون پر احباب کا بے حد شکریہ نیز ہدف کی تکمیل پر مبارکباد۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    $500.00
    اعلان ختم کریں

پسند کے لفظ پر شاعری

عثمان رضا نے 'اشعار اور گانوں کے کھیل' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 19, 2009

  1. عثمان رضا

    عثمان رضا محفلین

    مراسلے:
    4,594
    موڈ:
    Cool
    میں ایک شعر لکھونگا اس میں سے کسی بھی ایک لفظ پر آپ نے شعر لکھنا ہے ۔ یوں یہ سلسلہ چلتا رہے گا ۔

    مجبوریوں کی بات چلی ہے تو شراب کہاں‌
    ہم نے پیا ہے زہر بھی اکثر خوشی کے ساتھ
    ًمحسن نقوی

    عنوان درست نہ ہوتو ضرور بتائیے گا
     
    • زبردست زبردست × 1
  2. خوشی

    خوشی محفلین

    مراسلے:
    11,027
    تمہیں ضرور کوئی چاہتوں سے دیکھے گا
    مگر وہ آنکھیں ہماری کہاں سے لائے گا
     
    • متفق متفق × 1
  3. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بہت شکریہ۔ بہت اچھا عنوان ہے۔ آ جائیں خوشی ادھر۔
    --------------------------------------------------------------

    میرے کام بہت آتا ہے اک انجانا غم
    روز خوشی میں ڈھل جات ہے اک انجانا غم
    (ڈاکٹر پیرزادہ قاسم)
     
  4. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    یہ تو آپ میرے کہنے سے بھی پہلے آ گئیں۔
    ----------------------------------------------------------

    اک تندی سیلاب کا باعث بھی جو ٹھہری
    انکھوں کی فقط اشک فشانی ہی کہاں تھی
    (نزہت عباسی)
     
  5. خوشی

    خوشی محفلین

    مراسلے:
    11,027
    راہوں پہ کون آیا گیا کچھ پتہ نہیں
    اس کو تلاش کرتے رھے جو ملا نہیں
     
  6. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    تلاش

    تمام عمر یہی سوچ کر بسر کر دی
    سکونِ جاں کو کہا پر تلاش کرنا تھا
    (نزہت عباسی)
     
  7. عثمان رضا

    عثمان رضا محفلین

    مراسلے:
    4,594
    موڈ:
    Cool
    عمر چاہے مجھے ملے سو سال کی وہ تو ہوگی سزا میرے اعمال کی
    حاصل زندگی اس کو سمجھونگا دن تیری یاد میں جو بسر ہوگئے
     
  8. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    سال

    ہتھیلیوں پہ رکھے چراغوں کو خود بجھایا ہوا سے پہلے
    اُداس موسم میں بے بسی کا یہ سال کتنا عجیب سا تھا
    (نجم الثاقب)
     
  9. عثمان رضا

    عثمان رضا محفلین

    مراسلے:
    4,594
    موڈ:
    Cool
    عجیب

    تو اس قدر مجھے اپنے قریب لگتا ہے
    تجھے الگ سے جو سوچوں عجیب لگتا ہے
     
  10. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    قریب

    مجھے تمہاری نگاہوں پہ اعتماد نہیں
    مرے قرہب نہ آؤ! بڑا اندھیرا ہے
    (ساغر صدیقی)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. خوشی

    خوشی محفلین

    مراسلے:
    11,027
    میں غزل کی شبنمی آنکھ سے یہ دکھوں کے پھول چنا کروں
    مری سلطنت میرا فن رھے مجھے تاج و تخت خدا نہ دے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    شبنم

    پونچھو نہ عرق رخساروں سے رنگینیِ حسن کو بڑھنے دو
    سنتے ہیں کہ شبنم کے قطرے پھولوں کو نکھارا کرتے ہیں
    (قمر جلالوی)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. خوشی

    خوشی محفلین

    مراسلے:
    11,027
    شاید اسے بھی لے گئے اچھے دنوں کے قافلے
    اس باغ میں اک پھول تھا تیری طرح ہنستا ہوا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    دن

    دن کچھ ایسے گزارتا ہے کوئی
    جیسے احسان اتارتا ہے کوئی

    آئینہ دیکھ کے تسلی ہوئی
    ہم کو اس گھر میں پہچانتا ہے کوئی
    (گلزار)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. عثمان رضا

    عثمان رضا محفلین

    مراسلے:
    4,594
    موڈ:
    Cool
    گھر
    گھر کے بھیدی نے تو ڈھائی ہے قیامت شبنم
    کر گئی ہے مجھے رسوا سرِ بازار غزل
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    شبنم

    جانے کس خواب کی شبنم میں بھگوئے ہوئے ہم
    اور پھر کیسی زمینوں میں ہیں بوئے ہوئے ہم
    (قیوم طاہر)
     
  17. عثمان رضا

    عثمان رضا محفلین

    مراسلے:
    4,594
    موڈ:
    Cool
    خواب
    اک نام کی اُڑتی خوشبو میں اک خواب سفر میں رہتا ہے
    اک بستی آنکھیں ملتی ہے اک شہر نظر میں رہتا ہے
    امجد اسلام امجد
     
  18. خوشی

    خوشی محفلین

    مراسلے:
    11,027
    اس کے کوچے سے روز میرے سوا
    اور کس کا گزر زیادہ ھے
    اس کی آنکھیں چھپا نہیں سکتیں
    اس کی نیت جدھر زیادہ ھے
     
  19. ابن سعید

    ابن سعید خادم

    مراسلے:
    60,142
    آنکھوں سے آنسؤں کے مراسم پرانے ہیں
    مہماں یہ گھر میں آئیں تو چبھتا نہیں دھواں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  20. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    200,087
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    آنسو


    ہمارے آنسوؤں کا اب ہے جیسا جوش میں دریا
    نہ دیکھا ہم نے پر جوش ایسا اپنے ہوش میں دریا
    (بہادر شاہ ظفر)
     

اس صفحے کی تشہیر