لاہور ہائیکورٹ نے پی ٹی آئی، پی اے ٹی کو مارچ سے روک دیا

زرقا مفتی نے 'آج کی خبر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اگست 13, 2014

  1. زرقا مفتی

    زرقا مفتی محفلین

    مراسلے:
    3,591
    جھنڈا:
    Pakistan
    ظاہر ہے اصلاحات پارلیمنٹ ہی کرے گی مگرجب وہ آزاد ہوگی شریفوں کی ربر سٹیمپ نہیں ہوگی ۔ ذرا غور کیجئے کہ یہ مطالبہ کب سے کیا جا رہا ہے ۔ اب یہ مطالبہ پورا نہیں کیا گیا تو حکومت کو دباؤ میں لانے کے لئے احتجاج کیا جا رہا ہے جو ہر لحاظ سے جائز ہے ۔ حکومت پر دباؤ ڈالا گیا تو مذاکرات کے ڈول ڈالے گئے قوم سے خطاب ہوا اسی طرح دباؤ ڈال کر اصلاحات کے لئے ٹایم فریم اور طریقہ کار وضع کیا جاسکتا ہے وگرنہ شہباز کے بعد حمزہ نواز کے بعد مریم اور بلاول بختاور ہی ملک پر حکومت کرینگے
    67 سال سے نعرے لگ رہے ہیں کس کے کان پر جوں رینگی۔ اقتدار چند چہروں یا خاندانوں کی میراث بن گیا ہے ۔
    ابھی یہ معلوم نہیں کہ دھرنے کے لئے کس جگہ پر اتفاق ہوا ہے ڈی چوک پر دھرنا شاید ممکن بھی نہیں کھدائی کی وجہ سے۔اُمید ہے دھرنا انتظامیہ کی متعین کردہ جگہ پر ہی ہوگا
     
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  2. ایچ اے خان

    ایچ اے خان معطل

    مراسلے:
    14,183
    موڈ:
    Cool
    دھرنا دامن کوہ میں ٹھیک رہے گا۔
    برگر بچوں کی پکنک ہ بھی ہوجاوے گی
     
    • متفق متفق × 2
  3. فرحت کیانی

    فرحت کیانی لائبریرین

    مراسلے:
    11,085
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    غلطی سےبات کر دی تھی؟
    ابھی کچھ دیر قبل اپنے مداحین سے خطاب کرتے ہوئے خان صاحب نے پھر یہی بات کہی ہے۔
     
  4. عبدالقیوم چوہدری

    عبدالقیوم چوہدری محفلین

    مراسلے:
    18,403
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    ویسےوہ جگہ بڑی مناسب ہے۔
    کچھ دیگر ضروری مسائل کے لیے مزید انتظامات کرنے سے بھی بچت ہو جائے گی:battingeyelashes:
     
  5. ابن رضا

    ابن رضا لائبریرین

    مراسلے:
    4,258
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Brooding
    اس نام نہاد جمہوریت کا کچا چٹھا آج arynews نے 10 تا 11 بجے رات کے پروگرام میں بہت اچھی طرح کھولا ہے وزیر قانون رانا مشہود نے آن کیمرا رشوت لیکر سی ایم کی ملی بھگت سے 180 کیسسز میں مطلوب 13 ارب کا فراڈ کرنے والے مجرم کو کیسے فرار کرایا. نیز تڑکہ اس بات سے لگایا کہ کیسے اپنے پولٹری بزنس کوصرف تین ماہ میں چار چاند لگائے. شرم آنی چاہیے ایسے حکمرانوں کو جو یہ اقرار بھی کرتے ہیں کہ ہم ووٹ خریدتے نہیں بیچتے ہیں
     
    آخری تدوین: ‏اگست 13, 2014
    • متفق متفق × 2
    • زبردست زبردست × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  6. ایچ اے خان

    ایچ اے خان معطل

    مراسلے:
    14,183
    موڈ:
    Cool
    یہ نام نہاد جہموریت 2008 کے بعد پانچ سال تک درست تھی۔ 2002 کے بعد بھی درست تھی۔ جب ایک وزیر اعظم باہر سے امپورٹ ہوا تھا۔ جب حکومت ختم ہوتے ہی نکل گیا پتلی گلی سے ہانگ کانگ۔
     
    • متفق متفق × 1
  7. عبدالقیوم چوہدری

    عبدالقیوم چوہدری محفلین

    مراسلے:
    18,403
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بندہ بشر سے غلطی دوبارہ بھی تو ہو سکتی ہے :battingeyelashes:
     
    • زبردست زبردست × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  8. ایچ اے خان

    ایچ اے خان معطل

    مراسلے:
    14,183
    موڈ:
    Cool
    کہی تو اس نے اپنی طرف سے وہی تھی جو اوپر سے ملی تھی۔ بس ادھر سے ڈائریکشن کی غلطی تھی
     
  9. انیس الرحمن

    انیس الرحمن محفلین

    مراسلے:
    8,328
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    سنا ہے تعزیے ٹھنڈے ہوگئے انقلاب کے۔۔۔
    ویسے مزا آتا اگر جزوی گنجوں کو بیچ روڈ پر گھسیٹا جاتا قذافی کی طرح۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  10. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,393
  11. عبدالقیوم چوہدری

    عبدالقیوم چوہدری محفلین

    مراسلے:
    18,403
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اس 'ادھر' کی تشریح بھی کر دیں
     
  12. ایچ اے خان

    ایچ اے خان معطل

    مراسلے:
    14,183
    موڈ:
    Cool
    ادھر کوئی شاعری تو نہیں ہے
     
  13. عبدالقیوم چوہدری

    عبدالقیوم چوہدری محفلین

    مراسلے:
    18,403
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    تشریح صرف شاعری کی ہی ہوتی ہے کیا ؟
     
  14. ساجد

    ساجد محفلین

    مراسلے:
    7,113
    موڈ:
    Question
    سر زبیر ، اللہ آپ جیسا فہم ہر اس بندے کو دے جو اس افراتفری کو جائز اور جمہوری سمجھتا ہے ۔ جمہوری نظام میں معاملات کا حل پارلیمنٹ میں بات کر کے تلاش کیا جاتا ہے سڑکوں پر اشتعال پھیلانے سے نہیں اور حکومت کسی کی بھی ہو اسے ختم کرنے کے لئے آئینی طریقہ عدم اعتماد لانے کا ہے ۔ اگر آج خان صاحب ملک کو مفلوج کر کے ایک حکومت ختم کریں گے تو کل خود ہی اس قسم کے اشتعال سے اپنی حکومت کے دفاع کا اخلاقی حق کھو دیں گے ۔
     
    • متفق متفق × 2
  15. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    17,189
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amused
    جمہوری نظام صرف الیکشن نہیں ہوتا بلکہ جمہوریت میں عوام کو حقوق بھی دینے ہوتے ہیں۔ پاکستان میں جمہوریت نہیں بلکہhybrid regime قائم ہے۔

    ہمارے ہاں بدقسمتی ہے کہ جمہوریت کا معنیٰ و مفہوم بگاڑ دیا گیا ہے اور اسے محض سیاسی اور انتخابی آمریت کو قائم کرنے اور برقرار رکھنے کے لیے اس اصطلاح کو استعمال کیا جاتا ہے۔ اور جمہوریت کا پورا معنیٰ اور مفہوم اس کی ضرورت و مقاصد مکمل طور پر نظر انداز کر دیئے جاتے ہیں کہ یہ ہے کیا نظام؟

    جمہوریت کی اقسام:-
    کامل جمہوریت جس میں جمہوریت اپنے صحیح معنیٰ و مفہوم کے ساتھ اور اپنی روح کے ساتھ اور اپنے مقاصد کے ساتھ موجود ہے اسکو کامل جمہوریت کہتے ہیں

    ناقص جمہوریت کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ ان میں کچھ چیزیں ڈیموکریٹک ہیں‘ کچھ چیزیں آمرانہ ہیں گویا اس کے اندر مکسچر ہے کچھ جمہوری اقدار و روایات کا اور کچھ حصہ آمرانہ روایات و اقدار کا ہے۔

    ہائبرئیڈ ریجیمز (انتخابی آمریت)یہ ناقص جمہوریت سے بھی نیچے کا درجہ ہے ، اس کو انتخابی آمریت کہتے ہیں۔ جہاں الیکشن تو ہوتے ہیں مگر اس کے نتیجے میں ایک سیاسی آمریت قائم ہو جاتی ہے۔

    ہائبرئیڈ ریجیمز یہ بالکل گرا ہوا آخری درجہ ہے ، یہ ان ریاستوں کا ہے جہاں الیکشن ہوتے ہیں مگر الیکشن کے ذریعے جو سیاسی حکومتیں قائم ہوتی ہیں اُن کا طرز عمل آمرانہ ہوتا ہے۔ یعنی جمہوریت جو کچھ عوام کو دینا چاہتی ہے وہ عوام تک نہیں پہنچتا۔ عوام صرف پانچ سال کے بعد پرچی ڈالتے ہیں ووٹ کی اور بس ! اس کے علاوہ کوئی حق عوام کو نہیں پہنچتا جو جمہوریت انہیں دینا چاہتی ہے ۔اس لیے اس Hybrid Regimes کو انتخابی آمریت کہتے ہیں۔ پاکستان درجہ بندی کے حساب سے ہائبرئیڈ ریجیمز میں آتا ہے

    جان ہاپکنز یونیورسٹی کے پولیٹیکل سائنس کے محقق اینڈریس شیڈلر کے مطابق انتخابی آمریت ایک فوگی زون( Foggy Zone ) ہے ، دھندلا علاقہ ہے جہاں جمہوریت کا سورج نظر نہیں آتا۔

    ہماری بدقسمتی یہ ہے کہ ہم صرف انتخابی عمل کو جمہوریت کا نام دیتے ہیں اور پوری دنیا اس کو جھوٹ کہتی ہے ، اس کو فراڈ کہتی ہے کہ محض الیکٹورل پراسیس ، چار یا پانچ سال کے بعد الیکشن میں چلے جانا ، محض یہ جمہوریت نہیں ہے۔ جمہوریت ایک پورا نظام ہے۔

    اگر جمہوریت کے دس بنیادی حصے کر دیں تو اس میں ایک جزو الیکشن بھی ہے اور الیکشن کیا ہے اِس جمہوریت میں؟ انتقالِ اقتدار کے لیے الیکشن ایک پر امن جمہوری آلہ ہے ،ایک ٹول ہے۔ تو الیکشن ایک جزو ہے۔ انتخابات ساری جمہوریت نہیں ہے ، 9 اجزا اور ہیں وہ سارے پائے جائیں تو اس کو جمہوریت کہتے ہیں۔

    Elections have been an instrument of authoritarian control well as a means of Democratic Government
    سٹینفورڈ یونیورسٹی امریکہ کےپروفیسر لیری ڈائمنڈ جو پولیٹیکل سائنس پرایک اتھارٹی ہیں، نے اسی چیز کو اپنے آرٹیکل

    Elections without Democracy : Thinking About Hybrid Regimes

    میں واضح طور پر بیان کیاہے ۔
    وہ کہتا ہے:
    دنیا میں ایسے ممالک ہیں کہ جہاں الیکشن تو ہوتے ہیں مگر عوام کو جمہوریت نہیں ملتی۔ اکا دکا جمہوری چیزیں وہ کر دیتے ہیں مثلاً پریس کو آزادی دے دینا ، میڈیا کوایک آدھ چیز دے کروہ کریڈٹ لیتے ہیں کہ ہم نے پریس کو آزادی دے رکھی ہے ، مگر عوام کو اس جمہوریت سے کیا ملا ہے؟
    • ان کو بنیادی حقوق ملےہیں؟
    • ان کو جان کا تحفظ ملا ہے؟ روزگار ملا ہے؟
    • ریاستی فیصلوں میں عوام کا دخل ہو گیا ہے؟
    • ان کو سوشل سکیورٹی ملی ہے؟

    یہ وہ ساری چیزیں ہیں جو جمہوریتوں میں پائی جاتی ہیں۔جمہوریت میں ایک غریب آدمی بھی عدالت میں چلا جائے مغربی دنیا میں ، جمہوریت میں اور مقابلے میں امیر شخص ہو تو وہاں امیر اور غریب عدالت پہ اثر انداز نہیں ہو سکتے۔تو وہاں قانون کی بالادستی ہے۔
    جمہوریت یہ کلچر دیتی ہے ، عوام کو یہ چیزیں ملتی ہیں ، روزگار ملتا ہے ، صحت ، تعلیم کی سہولیات دیتے ہیں. یہ نہ ہو کہ پانی،بجلی ، گیس سے عوام محروم ہوں تو اس کو جمہوریت کوئی نہیں کہتا۔ یہ جو شور ہے کہ جمہوریت ہونی چاہئے تو یہ سمجھنا چاہئے کہ جمہوریت ہے کیا؟
    ڈاکٹر طاہر القادری کی ایک تقریر سے ماخوذ اقتباس ، تلخیص و تہذیب شدہ۔
     
    • متفق متفق × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. فرحت کیانی

    فرحت کیانی لائبریرین

    مراسلے:
    11,085
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    جی دوبارہ نہیں سہ بارہ بلکہ کئی بارہ۔ آخر بندہ بشر جو ہیں۔ اس مقولے کو دل و جان سے مانتے ہیں نا کہ انسان غلطی کا پُتلاہے۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  17. عبدالقیوم چوہدری

    عبدالقیوم چوہدری محفلین

    مراسلے:
    18,403
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بلکل۔ اس بندےبشر کا تعلق غلطیوں اور یوٹرنوں کے سلسلہِ جاریہ سے ہے۔ مستقل معافی دے دینی چاہیے:p
     
    • متفق متفق × 1
  18. زرقا مفتی

    زرقا مفتی محفلین

    مراسلے:
    3,591
    جھنڈا:
    Pakistan
    پاکستان میں کس درجے کی جمہوریت ہے ؟
    http://en.wikipedia.org/wiki/List_of_freedom_indices#List_by_country

    [​IMG]

    جمہوریت کے حوالے سے پاکستان کو Hybrid regimes کے زمرے میں دکھایا گیا ہے
    عمران خان حقیقی جمہوریت کے لئے کوشاں ہیں

    hybrid regime, is a governing system in which, although elections take place, citizens are cut off from knowledge about the activities of those who exercise real power because of the lack of civil liberties. It is not an 'open society'.
     
    آخری تدوین: ‏اگست 14, 2014
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  19. ایچ اے خان

    ایچ اے خان معطل

    مراسلے:
    14,183
    موڈ:
    Cool
    حقیقی جہموریت کے لیے کرے تو ٹھیک ہے مگر وہ تو اس راہ پر لگ رہا ہے کہ ملک ہائبرڈ امریت کی طرف جاتا لگ رہا ہے
     
    • متفق متفق × 2
  20. عبدالقیوم چوہدری

    عبدالقیوم چوہدری محفلین

    مراسلے:
    18,403
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    خان صاحب حقیقی جمہوریت کون نہیں چاہتا۔ انتخابات کا ایک مناسب وقفے کے بعدمنعقد ہونا ایک زبردست فلٹریشن سسٹم ہے۔ سیاسی پارٹیاں جو کچھ بوئیں گی وہی کاٹیں گی
     
    • متفق متفق × 2

اس صفحے کی تشہیر