1. اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں فراخدلانہ تعاون پر احباب کا بے حد شکریہ نیز ہدف کی تکمیل پر مبارکباد۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    $500.00
    اعلان ختم کریں

لیاقت علی عاصم غزل ۔ عد و کا ذکر نہیں دوستوں کا نام نہیں ۔ لیاقت علی عاصم

محمداحمد نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 17, 2009

  1. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,770
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    غزل

    عد و کا ذکر نہیں دوستوں کا نام نہیں
    زباں پہ آج کوئی حرفِ انتقام نہیں

    در و دریچہ کے داغ و چراغ اپنی جگہ
    مجھے جلا کے نہ گُزری تو شام شام نہیں

    چلو ٹھہر نہیں سکتے گزر تو سکتے ہو
    کہیں کہیں سے شکستہ ہے دل تمام نہیں

    جسے پکارتے پھرتے ہیں کُو بہ کُو ہم لوگ
    وہ ایک عہدِ تمنّا ہے صرف نام نہیں

    یہ خاکدانِ تعلق ہے پیش و پس میں نہ جا
    حصولِ آتش و آب و ہوا مدام نہیں

    کئی بُجھے ہوئے سینوں کو آگ ہے درکار
    زباں پہ نام تمھارا برائے نام نہیں

    لیاقت علی عاصم

     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  2. مغزل

    مغزل محفلین

    مراسلے:
    17,597
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dunce
    سبحان اللہ سبحان اللہ، واہ بہت خوب انتخاب ہے ماشا اللہ

    ایک شعر ہمیں یاد پڑتا ہے:

    عدو تھے حلقہِ یاراں میں مثلِ موئے سپید
    کہ ہم نے ایک نکالا تو دس نکل آئے
    لیاقت علی عاصم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,770
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ بھائی!

    عدو تھے حلقہِ یاراں میں مثلِ موئے سپید
    کہ ہم نے ایک نکالا تو دس نکل آئے
    لیاقت علی عاصم

    بہت عمدہ شعر ہے۔ خوش رہیے۔
     
  4. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,299
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    واہ واہ واہ، لاجواب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,770
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    بہت شکریہ وارث بھائی۔۔۔۔!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر