املا نامہ (طبع ثانی) ۔ مرتبہ ڈاکٹر گوپی چند نارنگ

فاتح نے 'تعلیم و تدریس' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ستمبر 25, 2009

  1. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    حوالے دیتے ہیں تو بات اساتذہ تک جاتی ہے:
    جبیں سجدہ کرتے ہی کرتے گئی
    حقِ بندگی ہم ادا کر چلے​
    ۔۔ میر تقی میر​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  2. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    کل ہی ایک صاحب سے بات ہو رہی تھی۔ میں نے یہیں سے حوالہ لے کر عرض کیا کہ: "پتہ ٹھکانا تو وہ ہوا جہاں میں رہتا ہوں، یا گیا ہوں؛ پتا درخت کا پودے کا ہوتا ہے۔"
    انہوں نے میر کا مصرع نقل کر دیا "پتا پتا بوٹا بوٹا حال ہمارا جانے ہے"۔ اور فرہنگِ آصفیہ سے انٹری نقل کر کے (پتا: بمعنی پتہ ٹھکانہ، گلی) فرمایا کہ: بتائیے یہ فرہنگ سند ہے یا نہیں؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  3. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    جی بجا فرمایا۔۔۔ چونکہ اردو میں آخری حرف مشدد نہیں ہوتا لہٰذا ثلاثی مجرد سے مشتق ایسے عربی الفاظ جن کے آخری دو حروف ایک ہی ہوں وہ اردو میں آ کر گڑبڑ کا باعث بنتے ہیں۔
    حق کے متعلق پھر یہی عرض کروں گا کہ حق کا ق مشدد ہونا "چاہیے" تھا لیکن میر تقی میر جیسے استاد نے غلط باندھا ہے تو یہ غلط العام کے زمرے میں آئے گا ورنہ درست حقِّ بندگی ہی ہے۔
    ویسے میر کے ہاں تو بہت کچھ ایسا ملتا ہے کہ جس کی مثال اور کہیں نہیں ملتی۔ بلکہ چھ دیوانوں کا پیٹ بھرنے کو اشعار کے نام پر وہ وہ رطب و یابس اور الم غلم ڈال رکھا ہے کہ کوئی تیسرے درجے کا شاعر بھی ویسے بے تکے اشعار نہیں کہتا ہو گا۔
     
    آخری تدوین: ‏جنوری 16, 2015
  4. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    نشان دہی کا شکریہ۔۔۔ یقیناً ٹائپنگ کی غلطی ہے۔

    اور اب۔۔۔
     
  5. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    حروف تو اگر ہوں تو مشدد ہوتے ہیں، رویے البتہ متشدد ہوا کرتے ہیں۔ مثال کے طور پر میر کے بارے میں حضور کے ارشاداتِ عالیہ! اس فقیر میں مزید گستاخی کا مرتکب ہونے کی ہمت نہیں ہے، مگر اس کا کیا ہو کہ غالب جس کا غلط بھی ٹھیک ہے وہ بھی میر پر اعتقاد رکھتا ہے اور استاد ناسخ بھی! غلطی تو میر نے کی ہے، کہ اس نے گوپی چند کا املاء نامہ پڑھا تک نہیں۔
    خیر یہ کون سی ایمانیات کی شرط ہے۔ چھوڑئیے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    مشدد اور متشدد کی بابت اصلاح پر شکریہ۔ :)
    میر کی بابت میری رائے کو تو آپ دل پر ہی لے گئے۔ مانتا ہوں کہ میر کے کلام میں کافی اچھے اشعار بھی موجود ہیں لیکن اس بات سے بھی انکار ممکن نہیں کہ چھ ضخیم دواوین گھڑنے کے لیے ان میں الا بلا بھی وافر مقدار میں بھرا گیا ہے۔ اگر آپ چاہیں تو میر کے دواوین سے ایسے بے تکے اور تیسرے درجے کے اشعار نکال کر آپ کی خدمت میں پیش کر سکتا ہوں۔
    رہی غالب کے غلط کو ٹھیک کہنے کی بات تو شاید آنجناب نے غور نہیں فرمایا کہ میں نے میر کے غلط کو بھی غلط العام (فصیح) قرار دیا ہے۔ لیکن وہاں حضور نے طنز کے تیر چلانے پر ہی اکتفا کیا کہ
    :laughing:

    بہرحال، یہ تو موضوع سے ہٹ کر باتیں تھیں اور بقول قبلہ و کعبہ نجم الدولہ دبیر الملک نظام جنگ حضرت میرزا ااسد اللہ بیگ خان غالب رحمۃ اللہ علیہ
    مقطع میں آ پڑی ہے سخن گسترانہ بات
    مقصود اس سے قطعِ محبت نہیں مجھے :)

    موضوع پر واپس آتے ہیں۔۔۔
     
    آخری تدوین: ‏جنوری 16, 2015
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  7. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    "خاکسار کی رائے میں آج تک تو املا نامہ کی تمام سفارشات ہی قابل قبول اور "قطعی" تھیں لیکن اگر آپ کے خیال میں کچھ سفارشات نا قابل قبول ہیں تو ان کی نشان دہی فرما دیجیے تا کہ ان پر بھی بات کی جا سکے"

    کمیٹی اپنا کام کر کے جا چکی۔ اب کون سی بات وہاں پہنچے گی؟ میں نے "املاء نامہ" محفوظ کر لیا ہے۔ باتیں ہوتی رہیں گی، ان شاء اللہ۔
     
  8. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    جیسا میں پہلے عرض کر چکا، یہ کوئی ایمانیات کا مسئلہ نہیں کہ میر کا، یا غالب کا، یا میرا، یا آپ کا کہا حرفِ آخر تسلیم ہو گا؛ یا نہیں ہو گا۔
    مختصر یہ ہے کہ مذکورہ "املاء نامہ" مجھے پوری طرح مطمئن نہیں کر پا رہا۔
     
  9. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    آپ کی وساطت سے ایک مفید دستاویز حاصل ہو گئی، ممنون ہوں۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  10. محمد اسامہ سَرسَری

    محمد اسامہ سَرسَری لائبریرین

    مراسلے:
    6,457
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    مفید۔ :)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  11. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    عطر آن است کہ خود ببوید، نہ عطار بگوید

     
  12. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    ایک مرتبہ پھر طنز کے تیر (اور وہ بھی زبانِ غیر میں ) چلانے پر شکریہ حضور۔ :)
    جو محاورہ آپ نے اوپر درج کیا ہے اس کی اصل صورت "گلستان سعدی" میں یوں درج ہے کہ
    مشک آں است کہ خود ببوید نہ آں کہ عطار بگوید
    جس صورت میں آپ نے لکھا ہے اس طرح اس کے معنی یہ بنتے ہیں کہ "عطر وہ ہوتا ہے جو خود بُو دیتا ہے نہ عطار بتاتا ہے" اور یوں اس کا مفہوم ہی بالکل الٹا ہو جاتا ہے۔

    آپ نے میرے جن دو مراسلوں کا اقتباس لیا ہے میں میر تقی میر کے متعلق اپنے ان بیانات پر نہ صرف قائم ہوں بلکہ عرض کر چکا ہوں کہ
    ان پر طنز کرنے کی بجائے بات کر لی جائے تو شاید مجھ سمیت کئیوں کا بھلا ہو جائے گا۔
     
    آخری تدوین: ‏جنوری 16, 2015
  13. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    کمیٹی تو کب کی مر کھپ چکی سوائے گوپی چند نارنگ کے۔ اور یوں بھی محفل میں پوسٹ کرنے کا مقصد کمیٹی تک بات پہنچانا نہیں تھا بلکہ سیکھنا مقصود تھا اور اسی لیے آپ سے یہ عرض کرنے کی جرات کی تھی کہ جو سفارشات آپ کی رائے میں قابلِ قبول نہیں ہیں ان کی نشان دہی فرما دیں تا کہ ان پر گفتگو ہو سکے اور ہمیں سیکھنے کا موقع مل سکے۔
     
  14. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    یہ ایک اور بحث ہو گی۔ عطر والی بات پر آپ کو جو اشکال ہو رہا ہے وہی کبھی مجھے بھی ہوا تھا، بعد میں رفع ہوا۔ بہر کیف، میں نے سعدی سے نقل نہیں کیا۔ مجھے "مستحِق" اور "مستحَق" والا مکالمہ بھی ہنوز یاد ہے۔

    آپ مذکورہ سفارشات کو "حتمی" کا درجہ دیجئے، مجھے کیا اعتراض ہو سکتا ہے۔ مجھے اپنے کہے پر اعتماد ہے۔
    یہاں گفتگو علمی سے زیادہ ذاتی بنتی جا رہی ہے، سو میں کنارہ کش ہوتا ہوں۔
     
  15. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    میری جانب سے تو اب بھی علمی ہی ہے۔۔۔ اگر آپ اسے پرسنل لے رہے ہیں تو کیا کہہ سکتا ہوں حضور
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  16. محمد یعقوب آسی

    محمد یعقوب آسی محفلین

    مراسلے:
    6,852
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
  17. طالب كشميري

    طالب كشميري محفلین

    مراسلے:
    112
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Angelic
  18. ثاقب حسن

    ثاقب حسن محفلین

    مراسلے:
    41
    جھنڈا:
    Pakistan
    سلام جناب فاتح صاحب۔امید ہے آپ بخیریت ہوں گے۔سَر مجھے املا میں کچھ پروبلم ہے وہ یہ کہ "چاہیئے، لیئے،کیئے اور ایسے کٸی الفاظ“ کو اگر بغیر ”ی“ کے لکھیں تو کیا یہ املا درست ہوگی؟ کاٸنڈلی اصلاح فرما دیجیئے۔آپ کا بہت احسان ہوگا۔اور املا کی درستی کے لیئے کسی کتاب کا نام بھی بتا دیجیئے۔
     
  19. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    9,898
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    ان تمام الفاظ کو "ء" کے بغیر لکھنا ہی درست سمجھا جاتا ہے۔
    چ ا ہ ی ے = چاہیے
    ل ی ے = لیے
    ک ی ے = کیے
    د ی ج ی ے = دیجیے

    گوپی چند نارنگ کی اسی املا نامہ کے علاؤہ رشید حسن خاں کی "اردو املا" بھی دیکھیے۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • متفق متفق × 1
  20. ثاقب حسن

    ثاقب حسن محفلین

    مراسلے:
    41
    جھنڈا:
    Pakistan
    بہت شکریہ سَر محمد خلیل الرحمٰن صاحب۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر