تبسم اس ضبطِ محبت نے آخر یہ حال کیا دیوانے کا ۔ صوفی تبسم

فرخ منظور نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اپریل 10, 2015

  1. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,872
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    اس ضبطِ محبت نے آخر یہ حال کیا دیوانے کا
    ہر آہ میں صورت شیون کی، ہر اشک میں رنگ افسانے کا

    وہ سحر تھا چشمِ ساقی میں یا مے خواروں کا جذبِ دروں
    ہر چند بھرے ہیں جام و سبو، وہ رنگ نہیں مے خانے کا

    کچھ حسن و عشق میں فرق نہیں، یہ جانتے ہیں سب اہلِ نظر
    تھا شمع کا آغاز وہی، انجام ہے جو پروانے کا

    ہوں اہلِ دیر کہ اہلِ حرم، سب پوجتے ہیں پوشیدہ صنم
    دیکھو تو در و دیوارِ حرم، نقشہ ہے وہی بُت خانے کا

    اب کس سے تبسّمِ راز کہیے، اب مہر و وفا کا دور نہیں
    اب دنیا کے وہ طور نہیں، اب اور ہے رنگ زمانے کا

    (صوفی تبسّم)​
     

اس صفحے کی تشہیر