مضمون اردو اور لاٹیک (Latex)

سبط الحسین نے 'اردو آئی۔ٹی ٹیوٹوریل' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 25, 2012

  1. سبط الحسین

    سبط الحسین لائبریرین

    مراسلے:
    49
    [​IMG]

    دراصل میں اس دھاگے کا موضوع اردو کتب کی تدوین اور لاٹیک رکھنے والا تھا۔ لیکن پھر خیال آیا کہ لاٹیک تو ایک بہت ہی جنیرک سافٹ وئیر ہے اور اس میں آپ کتب کی تدوین سے لے کر مکالمے، سائنسی اور تحقیقی مقالے،پوسٹرز، پریزینٹشنز اور دیگر مختلف اقسام کی ڈاکومنٹس وغیرہ تیار کر سکتے ہیں تو پھر اس کو کسی خاص صنف کے لیے مختص کرنا سراسر زیادتی ہو گی۔ لیکن جہاں تک اس مراسلے کا تعلق ہے تو ہم یہاں لاٹیک کو اردو کتب کی تدوین کے لیے ہی استعمال کریں گے۔

    اب ان تمام دوستوں کے لیے جو لاٹیک کے متعلق بالکل نہیں جانتے تو لاٹیک عام الفاظ میں دستا ویزت تیار کرنے کا ایک سسٹم ہے جو کہ ایک بہت ہی سادہ سی مارک اپ زبان استعمال کرتے ہوئے آپ کے متن کو بہت عمدہ اور اعلی کوالٹی (عموما) پی ڈی ایف فائل میں تبدیل کر دیتا ہے ۔ یہ سسٹم 1985 سے بہت کامیابی کے ساتھ مختلف قسم کی اعلی معیار کی دستاویزات تیار کرنے کے لیے استعمال ہو رہا ہے۔ خاص طور پر تعلیمی اور تحقیقی اداروں میں یہ بہت ہی وسیع پیمانے پر استعمال کیا جاتا ہے۔

    لاٹیک کا جہاں سب سےبڑا فائدہ یہ ہے کہ کوئی بھی دستاویز تیار کرتے ہوئے آپ اس کی فارمیٹنگ (ابواب ، فہرست مضامین ، حوالہ جات وغیرہ) کے متعلق پریشان ہوئے بغیر آپ اس کے متن پر توجہ دے سکتےہیں اور فارمیٹنگ کا ذمہ آپ لاٹیک کے حوالے کرسکتے ہیں وہا ں اس کا ا ایک چھوٹا سا کمزور پہلویہ بھی ہے کہ شروع میں اس کو سیکھنے کے لیے آپ کو تھوڑی بہت محنت کرنا پڑھتی ہے ۔ مگرایک بار آپ نے لاٹیک کے ذریعے سے چند سادہ ڈاکومنٹس تیار کر لیں تو بعد میں مختلف قسم کی دستاویزات بنا نا آپ کے لیے کافی آسان ہو جاتا ہےاور پھر آپ پہلے سے موجود سینکڑوں سانچوں کو استعمال کرتے ہوئے بہت عمدہ کوالٹی کی دستاویزات بغیر کسی دقت کےتیار کر سکتے ہیں۔ مزید براں یہ کہ آپ (میرے ذاتی خیال میں ) ورڈ اور ان پیج جیسے سافٹ وئیرز سے بھی چٹھکارا حاصل کرسکتے ہیں۔ اور اگر آپ کا تعلق تحقیق و تدریس سے ہے یا آپ کے پیشے میں لکھنے لکھانے کا کام زیادہ ہے تو میرے خیال میں لاٹیک خاص طور پر آپ کے لیے ہی بنایا گیا ہے۔ اگر آپ لاٹیک سیکھنا چاہتے ہیں تو انٹرنیٹ پر اس کو سیکھنے کے لیے بہت ہی عمدہ مواد دستیاب ہے۔ مثلا یہاں، یہاں اور یہاں۔ کیونکہ یہاں پر میرا مقصد یہ دکھانا ہے کہ ہم لاٹیک کو استعما ل کرتے ہوئے مختلف قسم کی اردو دستاویزات کیسے تیار کر سکتے ہیں نہ کہ لاٹیک سکھانا اس لیے لاٹیک سیکھنے کے لیے آپ کو اوپر دیے گئے کسی لنک کو یا پھر کسی کتاب سے رجوع کرنا ہو گا۔

    لاٹیک سے ملتا جلتا ہی پروگرام زیٹک (xetex) ہے جس کہ اندر لاٹیک کی (قریباً) تمام خصوصیات تو موجو د ہیں ہی مگر اس کی علاوہ اس کی خاص خوبی یہ ہے کہ یہ خاص طور پر یونی کوڈ (انکوڈنگ UTF-8 ) پر مشتمل ڈاکومنٹس کو تیار کرنے کے لیے استعمال ہوتا ہے ۔ زیٹک کسی بھی ترتیب کے بغیر آپریٹنگ سسٹم میں انسٹال فونٹ کو ان کی جدید ترین ٹائپوگرافک خصوصیات کے ساتھ براہ راست ڈاکومنٹس میں استعمال کر نے کی صلاحیت رکھتا ہے ۔ یہاں ہم زیٹک کی انہیں خصوصیات کا فائدہ اٹھاتے ہوئے اسے اردو کتب کی تدوین کے لیے استعمال کریں گے اور عمدہ کوالٹی کی دیدہ زیب کتب حاصل کریں گے :)۔

    لاٹیک میں کوئی بھی دستاویز لکھنے کے لیے ( عام الفاظ میں) آپ ایک سانچے کا استعمال کرتے ہیں۔ اس سانچے میں آپ خاص طور پر اپنی دستاویز کی فارمیٹنگ سے متعلق تمام خصوصیات کی تعریف کرتے ہیں ۔ مثلاً یہ کہ اس دستاویز کے لیے آپ فونٹ کو نسا استعمال کرنا چاہتے ہیں ، الفاظ اور لکیروں کے درمیان، درمیانی فاصلہ کتنا رکھنا چاہتے ہیں ، لکھائی جفت صفحے سے شروع کرنا چاہتے ہیں یا طاق پرسے ، اوپر، نیچے، دائیں ، بائیں مارجن کتنا رکھنا چاہتے ہیں وغیرہ وغیرہ۔ غرض آپ اپنی دستاویز کی فارمیٹنگ سے متعلق ہر چیز کو کسٹمائز کرسکتے ہیں۔ اس مرحلے کا سب سے آسان حل یہ ہوتا ہے کہ آپ پہلے سے سینکڑوں کی تعداد میں موجود میں سے کسی ایک سانچے کا تعین کر لیتے ہیں اور پھر اس میں اپنی ضرورت یا خواہش کے مطابق تبدیلیاں لے آتے ہیں۔ ایک بار اپ نے سانچہ منتخب اور کسٹمائز کر لیا تو آپ کی دستاویز کی فارمیٹنگ کا بڑا حصہ مکمل ہو جاتا ہے اور باقی کام صرف متن کی ٹائپنگ کا رہ جاتا ہے۔

    ہم یہاں اردو کی کتب کی تدوین کے لیے لاٹیک کا مشہور زمانہ بُک ٹیمپلیٹ یا سانچہ استعمال کریں گے جبکہ اس کے علاوہ زیٹک میں اردو کو استعمال کرنے کے لیے ہمیں جن پیکجز یا کمانڈز کی ضرورت پڑے گی اُن کی تفصیل ذیل میں دی گئی ہے ۔ خاص طور پر زیٹک میں اردو لکھنے کے لیے ہم polyglossia پیکج کا استعمال کریں گے کیونکہ یہ پیکج نہ صرف اردو کو پہچانتا ہے بلکہ تمام جملہ لوازمات مثلاً آج کی تاریخ، فہرست مضامین ، وغیرہ ہمارے کہنے پر خودبخود ہی ہماری دستاویزات میں اردو زبان میں شامل کردیتاہے ۔
    کوڈ:
    \usepackage{polyglossia}  %IMPORTANT. Allows using multiple languages in document. Knows about Urdu
    
    مگر polyglossia پیکج کے ساتھ اردو لکھنے کی شرط یہ ہے کہ ہمیں اس کو کم از کم ایک سسٹم انسٹالڈ اردو فونٹ (urdufont) کے متعلق بتانا پڑھتا ہے ۔ یہاں پر ہم جمیل نوری نستعلیق فونٹ کو دستاویزات کے میجر فونٹ کے طور پر استعمال کریں گے ۔ اور اس فونٹ کی تعریف ہم fontspec پیکج کی کمانڈ newfontfamily\ کے ذریعے سے کریں گے ۔
    کوڈ:
    %\newfontfamily<font-identifier>[options]{font name}
    \newfontfamily\urdufont[Script=Arabic,Scale=1,WordSpace=1]{Jameel Noori Nastaleeq}  % Main document font, urdu option polyglossia requires you to define a font name with urdufont.
    
    فونٹ کی تعریف کرتے وقت ہم فونٹ کے استعمال سے متعلق مختلف آپشنز کا استعمال کرتے ہوئے مختلف فارمیٹنگ کے ساتھ دستاویزات تیار کر سکتے ہیں ۔ ان مختلف اقسام کی آپشنز کے بارے میں تمام تفصیلات تو fontspec پیکج کی ڈاکومنٹیشن میں ہی پڑھی جا سکتی ہیں ۔ مگر یہاں ہماری ضرورت کے حساب سے دو نہایت ہی کارآمد آپشنز فونٹ سائز یعنی scale اور حروف کے درمیانی فاصلے یعنی wordspace کی ہیں ۔ مثال کے طور پر اگر ہم الفاظ کا درمیانی فاصلہ زیادہ رکھنا چاہتے ہیں تو wordspace آپشن کو بڑی ویلیو کے ساتھ استعمال کریں گے ۔ اسی طرح بڑے فونٹ سائز کے لیے ہم بڑی اسکیل ویلیو کا استعمال کریں گے ۔ دو مختلف wordspace ویلیوز کے ساتھ تیار کی گئی کتب کی مثالیں ملاحظہ کریں۔
    سنگل wordspace کی ایک مثال۔
    [​IMG]

    ڈبل wordspace کی ایک مثال۔
    [​IMG]

    اس کے علاوہ نیو فونٹ فیملی کمانڈ کے ذریعے سے ہم دوسرے اور تیسرے درجے کے فونٹز کی بھی تعریف کر سکتے ہیں ۔ مثال کے طور پر ہم اپنی کتا ب میں جمیل نوری نستعلیق کشیدہ فونٹ کا استعمال ابواب کے نام کے لیے استعمال کریں گے ۔ پس ہم اس کی بھی تعریف کیے دیتے ہیں۔
    کوڈ:
    \newfontfamily\nast[Script=Arabic,Scale=1.2,WordSpace=1]{Jameel Noori Nastaleeq Kasheeda}  % or Nafees 2nd level font used for chapter and section headings
    
    لیں جناب! اس تمام محنت کے بعد ہمارا سانچہ مکمل ہے ۔جس کی شکل کچھ اس طرح کی ہے۔
    کوڈ:
    \documentclass{book}
    \usepackage[margin=1in]{geometry}  % set all margins (left, right, top, bottom) to 1 inch
    \usepackage{polyglossia}  %IMPORTANT. Allows using multiple languages in document. Knows about Urdu
    \setmainlanguage[numerals=eastern]{urdu}  % main language for the document will be urdu with eastern numerals
    % Now define the fonts that will be used by the document
    \newfontfamily\urdufont[Script=Arabic,Scale=1,WordSpace=1]{Jameel Noori Nastaleeq}  % Main document font,
    \newfontfamily\nast[Script=Arabic,Scale=1.2,WordSpace=1]{Jameel Noori Nastaleeq Kasheeda}  %  2nd level font used for chapter and section headings
    \rightfootnoterule  % force footnote separator rule to appear at right
    % title of book
    \title{فردوس بریں} % title page of the document
    \author{مولانا عبد الحلیم شرر}
    \date{\today} % insert date of today on the title page
    \begin{document} % your main document start from here
    \begin{urdu} % start typing your document.
    \maketitle % Create a title page
    \tableofcontents % also generate table of contents
    \chapter{{ پریوں کا غول}} % start first chapter here and after that start typing the content of chapter.
    اب تو سنہ ٦٥٠ ہجری ہے،  مگر اس سے ڈیڑھ سو سال پیشتر سے سیاحوں اور  خاصۃً  حاجیوں کے لئے وہ کچی اور اونچی نیچی سڑک نہایت ہی اندیشہ ناک اور  پرخطر ہے جو بحر حزر (کیسپین سی) کے جنوبی ساحل سے شروع ہو ئی ہے اور شہر  آمل میں ہو کے شاہنامے کے قدیم دیوستان یعنی ملک ماژندران اور علاقہ رودبار  سے گزرتی اور کوہسار طالقان کو شمالاً و جنوباً قطع کرتی ہوئی شہر قزوان  کو نکل گئی ہے۔ مدتوں سے اس سڑک کا یہ حال ہے کہ دن دہاڑے بڑے بڑے قافلے لٹ  جاتے ہیں اور بے گناہوں کی لاشوں کو برف اور سردی  مظلومی و قتل و غارت کی  یادگار بنا کے سالہا سال تک باقی رکھتی ہے۔
    ...
    \end{urdu}% finished writing urdu
    \end{document}% document is finished
    
    اس تمام مرحلے کے اختتام پر جو پی ڈی ایف فائل ہمیں ملے گی اس کی جھلک ملاحظہ فرمائیں۔ پورا پی ڈی ایف آپ آخر میں دیئے گئے لنک سے ڈاؤنلوڈ کرسکتے ہیں۔
    [​IMG]

    تمام شاعر حضرات یا شاعر ی کے دلدادہ افراد bidipoem پیکج کی traditionalpoem انوائارنمینٹ کو استعمال کرتے ہوئے اپنی غزلوں اور نظموں کی تدوین بھی بہت سہل طریقے سے کر سکتے ہیں۔ مثلاً آپ اس سادہ سے کوڈ کو استعمال کر تے ہوئے
    کوڈ:
    \begin{traditionalpoem}
    وہ بتوں نے ڈالے ہیں وسوسے کہ دلوں سے خوفِ خدا گیا & وہ پڑی ہیں روز قیامتیں کہ خیالِ روزِ جزا گیا\\
    جو نفس تھا خارِگلو بنا، جو اٹھے تو ہاتھ لہو ہوئے& وہ نشاطِ آہ سحر گئی وہ وقارِ دستِ دعا گیا\\
    نہ وہ رنگ فصلِ بہار کا، نہ روش وہ ابرِ بہار کی &  جس ادا سے یار تھے آشنا وہ مزاجِ بادِ صبا گیا \\
    جو طلب پہ عہدِ وفا کیا، تو وہ آبروئے وفا گئی &  سرِ عام جب ہوئے مدّعی تو ثوابِ صدق و صفا گیا \\
    ابھی بادباں کو تہہ رکھو ابھی مضطرب ہے رخِ ہوا \\ کسی راستے میں ہے منتظر وہ سکوں جو آکے چلا گیا\\
    \end{traditionalpoem}
    
    جو پی ڈی ایف فائل حاصل کرسکتے ہیں اس کا پیش منظر ملاحظہ کیجیے ۔
    [​IMG]

    دراصل لاٹیک ( زیٹک) ایک مکمل سافٹ وئیر ہے اور یہاں پر میں نے اس کی صرف چند چیدہ چیدہ خصوصیات کا ذکر کیا ہے ۔ اس کے متعلق مکمل تفصیلات تو آپ مختلف آن لائن ڈاکومنٹیشنز اور دوسرے ذرائع سے ہی حاصل کرسکتے ہیں۔ لیکن اس سلسلے میں اگر آپ کچھ پوچھنا چاہیں تو میں جواب دینے کی اپنے تئیں پوری کوشش کروں گا۔

    سافٹ وئیر۔
    لاٹیک میں اردو لکھنے کے لیے آپ کو ایک سادہ ٹیکسٹ ایڈیٹر کی ضرورت ہو گی جو کہ اردو کو سپورٹ کرتا ہو اور جس میں syntax coloring (ضروری نہیں) کی سہولت بھی موجود ہو مثلاً جیسے لینکس میں gedit وغیرہ ۔ اس کے علاوہ آپ کے سسٹم پر texlive یا (ونڈوز کے لیے )miktex کا جدید ترین ورژن بھی انسٹال ہونا چاہیے۔ میں نے یہ تمام ڈاکومنٹس اوبنٹو پر texlive 2012 ورژن استعمال کرتے ہوئے تیار کیے ہیں۔ مگر امید ہے miktex کو استعمال کرتے ہوئے ونڈوز پر بھی اسی سہولت کے ساتھ آپ دستاویزات تیار کرسکتے ہیں کیونکہ میرے پاس ونڈوز آپریٹنگ سسٹم نہیں ہے اس لیے میں اپنے ذاتی تجربے کے متعلق بتانے سے قاصر ہوں۔ (برائے معلومات) اس کے علاوہ میں نے یہاں پر html2latex سوفٹ وئیر کا استعمال بھی کیا ہے۔

    مزید براں یہ کہ آپ کو ڈاکومنٹ لکھتے ہوئے دونوں اردو اور انگریزی کی بورڈز کی ضرورت پڑھے گی اس لیے بہتر ہو گا اگر آپ کی بورڈز کی تبدیلی کے لیے پہلے سے ہی کوئی شرٹ کٹ مختص کرلیں۔ اس کے علاوہ دائیں سے بائیں اور بائیں سے دائیں لکھائی سے جو جنجھلاہٹ پیدا ہوتی اس سے بچنے کے لیے ضروری ہے کہ آپ لاٹیک کی کمانڈز کو ایک علیحدہ لائن پر لکھیں ۔


    کوڈ۔
    آپ تمام کے تمام ڈاکومنٹس اور لاٹیک کوڈ یہاں سے ڈاؤنلوڈ کرسکتے ہیں۔

    کریڈٹس۔
    لاٹیک کو اردو دستاویزات کی تیاری کے لیے استعمال کرنے کے متعلق تو میں کافی دنوں سے سوچ رہا تھا لیکن اس دھاگے کو لکھنے کی تحریک مجھے اردو لائبریری پراجیکٹ اور ابن سعید اور نبیل بھائی سے گفتگو سے ملی ۔ جبکہ لاٹیک میں اردو لکھنے کے متعلق بہت ساری معلومات اور مواد میں نے اس بہت ہی معلوماتی ویب پیج سے حاصل اور کاپی کیا ہے۔
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏اکتوبر 2, 2017
    • زبردست زبردست × 13
    • معلوماتی معلوماتی × 7
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  2. ابن سعید

    ابن سعید خادم

    مراسلے:
    60,037
    اس خوبصورت تحریر کا بے حد شکریہ۔ اس موضوع پر مزید گفتگو ہونی چاہئے کیوں کہ اس سے اردو ویب ڈیجیٹل لائبریری کو بھی کافی مدد ملے گی۔ ہم ذرا مصروف ہیں، تھوڑی سی فراغت نصیب ہو تو اس بابت کچھ عرض کریں گے ان شاء اللہ۔ :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  3. سبط الحسین

    سبط الحسین لائبریرین

    مراسلے:
    49
    جی ضرور ، انشااللہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  4. نبیل

    نبیل محفلین

    مراسلے:
    16,612
    جھنڈا:
    Germany
    موڈ:
    Depressed
    پہلے تو میں سبط الحسین کا شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں کہ انہوں نے اس موضوع پر اتنی معلوماتی تحریر پوسٹ کی۔ میں نے اس مرتبہ کی فورم کی سالگرہ پر اسی موضوع پر لکھنے کا سوچا ہوا تھا لیکن مصروفیت کے باعث مناسب تحقیق نہیں کر پایا تھا اور میرے تجربات کے نتائج بھی ابھی تک زیادہ حوصلہ افزا نہیں تھے، لیکن سبط الحسین نے میری مشکل آسان کر دی ہے۔ میں نے اوبنٹو پر xetex کا استعمال کرتے ہوئے اردو ٹائپ سیٹنگ کے کچھ تجربا ت کیے تھے۔ جلد ہی ان کے بارے میں لکھوں گا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  5. Selahudin Munawar

    Selahudin Munawar محفلین

    مراسلے:
    12
    السلام علیکم ماشاء اللہ بہت خوبصورت تجربہ بیان فرمایا ہے ۔ میں ابھی اس کا تجربہ کرنے لگا ہوں امید ہے سمجھ بھی گیا ہوں گا ۔:lol:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  6. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,318
    السلام علیکم ، سبط بھائی آپ مزید علمی و معلوماتی تحاریر بھی شیئر کیجیے پلیز، آپ کے لکھنے کا انداز بہت رواں اور آسان ہے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. سبط الحسین

    سبط الحسین لائبریرین

    مراسلے:
    49
    بہت شکریہ حوصلہ افزائی کا۔ جی آپی ضرور میں کوشش کروں گا اپنی علمی استطاعت کے حساب سے وقتا فوقتاً کچھ نہ کچھ شئیر کرتا رہوں۔
     
  8. محب علوی

    محب علوی لائبریرین

    مراسلے:
    11,253
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ماشاءللہ بہت معلوماتی اور سادہ انداز میں تکنیکی موضوع پر عمدہ تحریر ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  9. ابن سعید

    ابن سعید خادم

    مراسلے:
    60,037
    ہم لینکس مشین پر عموماً میک فائل کی مدد سے کمانڈ لائن سے لاٹیک کمپائل کیا کرتے تھے۔ لیکن کچھ عرصہ قبل ایک سادہ سا لاٹیک ایڈیٹر گمی ہاتھ لگا، تب سے اسے استعمال کر رہے ہیں۔ یہ ایڈیٹر کئی فنکشنالیٹیز کے لئے ٹیک لائو اور دیگر کئی پیکیجیز پر تکیہ کرتا ہے۔ سننے میں آیا ہے کہ اس کا ونڈوز انسٹالر بھی دستیاب کرایا گیا ہے۔ اس کے علاوہ ہم لاٹیک لیب نام سے ایک عدد آن لائن لاٹیک ایڈیٹر بھی استعمال کر چکے ہیں جسے گوگل ڈاکس کے ساتھ انٹگریٹ کیا گیا ہے۔ :)
     
  10. ابن سعید

    ابن سعید خادم

    مراسلے:
    60,037
    وکیپیڈیا پر لاٹیک ایڈیٹرز کا موازنہ دیکھ رہے تھے تو پایا کہ جی ایڈیٹ کے لئے ایک عدد پلگ ان دستیاب ہے۔ فی الحال یہ پلگ ان جی ایڈٹ کے تازہ نسخے کے ساتھ کام نہیں کر رہا۔ اگر کام کرنے لگا تو شاید ہم گمی کو دعا سلام کر کے رخصت کر دیں کیوں کہ زیادہ تر پروگرامنگ جی ایڈٹ میں ہی کرتے ہیں تو اسی کانٹیکسٹ میں رہ کر کام کرنا زیادہ سہل ہوگا۔ :) :) :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. سبط الحسین

    سبط الحسین لائبریرین

    مراسلے:
    49
    خیر میں تو زیادہ تر لاٹیک کے لیے کیل (kile) کا استعمال کرتا ہوں جو کہ کافی اچھا ایڈیٹر ہے حالانکہ یہ یونی کوڈ کو سپورٹ کرتا ہے مگر اردو کے الفاظ صحیح طرح نہیں دکھاتا ۔اس کے علاوہ بسا اوقات جی ایڈیٹ سے بھی واسطہ پڑتا رہتا ہے کیونکہ میں جی ایڈیٹ کا پرانا ورژن استعمال کر رہا ہوں اس لیے میرے پاس لاٹیک کا پلگ ان انسٹالڈ ہے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. نایاب

    نایاب لائبریرین

    مراسلے:
    13,423
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Goofy
    ڈاونلوڈ کر کے انسٹال تو کر لیا ۔ لیکن خدا گواہ کہ ذرہ بھر سمجھ نہیں آئی
    کہ کہاں لکھنا ہے ۔ کیسے لکھنا ہے ۔ اور مین ونڈو پر اوپر کی جانب ٹولز اتنے ہیں کہ
    سمجھ آتے آتے پتلی گلی سے نکل جاتی ہے ۔
    کاش کوئی محترم دوست اس بارے اک مفصل ٹیوٹوریل لکھ دے ۔
    تاکہ مجھ جیسے انگلش سے نابلد بھی اسے استعمال کر سکیں ۔
    جزاک اللہ خیراء
     
    • پر مزاح پر مزاح × 3
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • متفق متفق × 1
  13. عمار عاصی

    عمار عاصی محفلین

    مراسلے:
    49
    بہت خوب۔ اس قدر تکنیکی مضمون کو بے حد سہل انداز سے پیش کیا ہے۔

    آپ کا دیا گیا کوڈ ونڈوز میں مکٹیک کے ذریعے آزمایا ہے اور نتیجہ بہترین۔ جو حضرات لاٹیک سے واقف نہیں ان کے لیے ونڈوز پر سیٹ اپ کا آسان طریقہ ذیل میں بیان کر رہا ہوں

    سب سے پہلے اس ربط سے مکٹیک کا انسٹالر (Basic MiKTeX 2.9 Installer) ڈاؤنلوڈ کر لیں۔ انسٹالر کا سائز 159mb ہے۔

    انسٹالر کو چلائیں اور جب ذیل کی سکرین آئے تو Install Missing packages on the fly کے لیے Yes کی آپشن منتخب کر لیں۔ اس کا فائدہ یہ ہو گا کہ جب آپ اپنے لاٹیک کوڈ میں کوئی نیا پیکج استعمال کرنا چاہیں گے تو کمپائل کرتے وقت وہ پیکج خود ہی ڈاؤنلوڈ ہو جائے گا۔
    [​IMG]

    انسٹالیشن مکمل ہو جانے پر سٹارٹ مینیو میں Miktex 2.9 نام کا نیا فولڈر بن جائے گا۔ اس فولڈر میں TeXworks نامی پروگرام کو چلالیں۔ TeXworks دراصل ایک سادہ لاٹیک ایڈیٹر ہے جو مکٹیک کے ساتھ ہی انسٹال ہو جاتا ہے۔

    اب ٹیک ورکس میں آپ لاٹیک کی سورس فائل کھول لیں۔ ذیل کی تصویر میں، میں نے سبط بھائی کی فراہم کردہ فائلوں میں سے adhori-baat-2.tex نام کی فائل کھول رکھی ہے۔ اس کوڈ کو کمپائل کرنے سے پہلے ایک بات کا خیال رکھنا ہو گا کہ جو فونٹس آپ اپنی ڈاکومنٹس میں استعمال کرنا چاہ رہے میں وہ آپ کے سسٹم میں پہلے سے انسٹال ہوں ورنہ کمپائل کرنے وقت ایرر آئیں گے۔ لہذا اگر ضرورت ہو تو کوڈ میں استعمال شدہ فونٹ کے نام تبدیل کر دیں۔
    [​IMG]

    آخری مرحلہ فائل کو کمپائل کرنے کا ہے۔ اس کے لے ٹول بار میں جو بائیں طرف ایک ڈراپ ڈاؤن باکس ہے، اس میں XeLaTeX کا ٹول منتخب کر لیں۔
    [​IMG]

    اور پھر اس کے بائیں طرف سبز رنگ کے آئکن پر کلک کر دیں۔ کمپائلیشن شروع ہو جائے گی اور کچھ ہی دیر میں پی ڈی ایف فائل تیار ہو کر آپ کے سامنے ہو گی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
    • زبردست زبردست × 2
    • معلوماتی معلوماتی × 2
  14. نایاب

    نایاب لائبریرین

    مراسلے:
    13,423
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Goofy
    محترم عمار عاصی بھائی
    بہت توجہ اور اتنے آسان انداز میں سمجھانے پر
    جزاک اللہ خیراء
    میں نے محترم سبط الحسین بھائی کی پوسٹ پڑھ کو جو پروگرام ڈاونلوڈ کیا تھا ۔
    وہ تو کچھ ایسے نظر آتا ہے ۔۔۔۔
    اور مجھے سمجھ نہیں آتی کہ اس میں کیسے لکھوں ۔
    گر توجہ مل جائے تو
    جزاک اللہ خیراء
    [​IMG]


    [​IMG]
    [​IMG]
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. عمار عاصی

    عمار عاصی محفلین

    مراسلے:
    49
    نایاب بھائی، آپ نے جو پروگرام ڈاؤنلوڈ کیا ہے یہ ایک کافی پیچیدہ لاٹیک ایڈیٹر ہے، اس کی فی الحال آپ کو ضرورت نہیں پڑے گی۔ آپ کو صرف MikTeX ڈاؤنلوڈ کرنا ہے جس کا ربط میں نے اپنی پچھلی پوسٹ میں دیا اور سبط بھائی نے بھی وہی ربط دیا تھا۔ اسے ڈاونلوڈ کر کے اوپر دیے گئے طریقے پر عمل کریں۔ اس میں کسی مسئلے کا سامنا ہو تو یہاں ذکر کریں، ان شاء اللہ مدد کرنے کی پوری کوشش کروں گا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. منصور احمد

    منصور احمد محفلین

    مراسلے:
    76
    سبط الحسین صاحب بہت عمدہ تحریر۔۔۔۔ ضرور اس سافٹ وئیر پر ہاتھ صاف کریں گے۔۔۔ بہت شکریہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  17. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,818
    موڈ:
    Busy
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  18. غلام ربانی فدا

    غلام ربانی فدا محفلین

    مراسلے:
    805
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Question
    بہت اچھا سوفٹویر ہے۔
     
  19. راقم

    راقم محفلین

    مراسلے:
    236
    موڈ:
    Cool
    لگتا ہے احباب کسی اچھی چیز کی بات کر رہے ہیں جو اردو کی ترقی میں معاون ہو گی۔
    میں صرف دعا ہی کر سکتا ہوں کہ اللہ آپ کے لیے آسانیاں پیدا فرمائے۔
    آمین
     
  20. گرائیں

    گرائیں محفلین

    مراسلے:
    909
    او لا تو سبط الحسین صاحب کا شکریہ کہ ان کی دی گئی فائلوں کی بدولت میں اب تک کوئی چالیس کے قریب صفحات اردو میں لاٹیک میں لکھ چکا ہوں۔ بس ایک جگہ مسئلہ آ رہا ہے اور اسی مسئلے کے حل کی خاطر یہاں رجوع کیا ہے۔
    ایک اردو مضمون کے دوران اگر کوئی انگریزی اقتباس آ جائے تو وہ سارے کا سارا رائٹ ٹو لیفٹ ہوتا ہے۔ مثلا دس از آ کیٹ کچھ اس طرح لکھا جاتا ہے کیٹ آ از دس۔ سٹیک ایکسچینج اور اس قسم کی دوسری ویب سائٹس پر تحقیق کی تو کوئی خاص حل نہیں ملا۔ یا شائد میں موزوں الفاظ لکھ کر تلاش نہیں کر پارہا تھا۔
    کیا اس معمے کا حل نکل سکتا ہے؟
     

اس صفحے کی تشہیر