آج کا بلاگ - آپ کے بلاگ پر نئی پوسٹ کا اقتباس!

سارہ پاکستان نے 'اردو بلاگنگ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 30, 2009

  1. فخرنوید

    فخرنوید محفلین

    مراسلے:
    3,211
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    جناب آپ نے درست فرمایا روانی میں حقوق اللہ لکھ گیا
     
  2. محمد علم اللہ

    محمد علم اللہ محفلین

    مراسلے:
    5,832
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Daring
  3. زبیر مرزا

    زبیر مرزا محفلین

    مراسلے:
    5,997
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Shh
    محمد اسد کی بہترین تحریر
    مکھی جیسے لوگ
    جس طرح مکھی تمام جسم کو چھوڑ کر صرف گندے زخم پر بیٹھتی ہے ویسے ہی یہ مکھی جیسے لوگ تمام تر اچھائیاں چھوڑ کر برائیاں گنواتے رہتے ہیں۔
    http://bilaunwan.wpurdu.com/people-like-flies/
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  4. نظام الدین

    نظام الدین محفلین

    مراسلے:
    1,005
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Brooding
    دیہاتی افسانے

    جذباتی افسانوں کے بعد ایک آدھ نمونہ دیہاتی افسانوں کا بھی ملاحظہ فرمائیے۔ یہ افسانے اپنے دلکش ماحول اور طرزِ تحریر کی سادگی کی وجہ سے بے حد مقبول ہیں۔ ان میں یہ کوشش کی جاتی ہے کہ کوئی ایسی بات تحریر نہ کہ جائے جو غیر فطری یا غیر دیہاتی ہو۔ چنانچہ تشبیہیں، استعارے، محاورے سب دیہاتی ہوتے ہیں۔ حتیٰ کہ بعض دفعہ احساسات تک دیہاتی ہوجاتے ہیں۔
    مزید دیکھئے

    http://urdu-followers.blogspot.co.uk/2015/05/blog-post_21.html
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. فلک شیر

    فلک شیر محفلین

    مراسلے:
    7,367
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Shh
  6. فخرنوید

    فخرنوید محفلین

    مراسلے:
    3,211
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    سدھارتھ گوتم جسے بعد میں بدھا کہا گیا۔ اس کی کہانی قصوں سے اس قدر لبریز ہے کہ ہمیں اس کے واقعی وجود کے متعلق شک ہونے لگتا ہے۔ ایک قصے نے اسے کنواری ماں کا بیٹا قرار دیا۔ ہمیں بتایا گیا ہے کہ اس نے خود ملکہ مایا کے پہلو کو کھولا ، کوکھ میں داخل ہوا اور دس ماہ تک وہاں رہنےکے بعد باہر نکلا

    “ناپاک رطوبتوں سے بالکل پاک ” ، لیکن ” سیڑھیاں اترتے ہوئے آدمی کی طرح ” اور ” موتی کی طرح چمکتا ہوا۔”

    بایں ہمہ اس کا باپ ہمالیہ کے نزدیک کپل وستو کا بادشاہ تھا۔ بدھ کا نام سدھارتح گوتم رکھا گیا۔ اسےہر قسم کی آسائش کے علاقہ دکھ اور تکلیف سے دور رکھا گیا، پانچ سو خوب صورت دوشیزاوں میں سئے اس کے لئے بیوی منتخب کی گئی۔ وہ ایک مسرور باپ بنا اور امن و آشتی کی زندگی گزاری۔
    مزید تفصیل:
    سدھارتھ گوتم سے بدھا تک کا سفر
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  7. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    22,176
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    چھلانگ
    احمد صغیر صدیقی
    (منتخب / مختصر افسانہ)


    چند نو عمر لڑکے ایک جگہ کھڑے تھے ایک لڑکے کے ہاتھ میں ایک نقشہ دبا ہوا تھا۔ یہ دنیا کا نقشہ تھا۔۔ اُن میں سے ایک لڑکے نے نقشہ چھیننے کے لئے جھپٹا مارا اور پہلے لڑکے کے ہاتھ میں دبے کاغذ کا ایک حصہ نوچتا ہوا لے اُڑا۔

    پھر بقیہ لڑکوں نے بھی نقشے کے لئے اُچھال بھری۔۔۔۔۔

    مزید پڑھیے۔
     
    • زبردست زبردست × 1
  8. زبیر مرزا

    زبیر مرزا محفلین

    مراسلے:
    5,997
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Shh
    افتخار اجمل بھوپال صاحب کے بلاگ سے
    یومِ آزادی اور ہمارا کردار
    عصرِ حاضر میں یہ روائت بن گئی ہے کہ شاید اپنے آپ کو اُونچا دکھانے کیلئے اپنے وطن پاکستان کو نِیچا دکھایا جائے
    یہ فقرے عام سُننے میں آتے ہیں
    ” اس مُلک نے ہمیں کیا دیا ہے “۔
    ”کیا رکھا ہے اس مُلک میں“۔
    بہت افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ مُلک کے اندر ہی نہیں مُلک کے باہر بھی میرے کچھ ہموطن اپنے مُلک اور اپنے ہموطنوں کو بُرا کہتے ہیں ۔ وہ بھی صرف آپس میں نہیں بلکہ غیر مُلکیوں کے سامنے بھی ۔ حقیقت میں ایسے لوگ عقلمند نہیں بلکہ بیوقوف ہیں کیونکہ وہ نہیں جانتے کہ وہ خود اپنے آپ کو بدنام کر رہے ہیں
    http://www.theajmals.com/blog/2015/08/یومِ-آزادی-اور-ہمارا-کردار/comment-page-1/#comment-63435
     
  9. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    22,176
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    اپنی کلاہ کج ہے اسی بانکپن کے ساتھ

    ایک انٹرویو میں کسی نے جناب سراج الحق صاحب (امیر ِ جماعتِ اسلامی) سے پوچھا کہ آپ ٹوپی ٹیڑھی کیوں لگاتے ہیں تو سراج الحق صاحب نے جو جواب دیا وہ بڑا حیران کن تھا۔

    انہوں نے کہا کہ بچپن میں جب وہ اسکول جاتے تھے تو اُن کے پاس پہننے کے لئے چپلیں نہیں تھیں۔

    مزید پڑھیے۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  10. محمد علم اللہ

    محمد علم اللہ محفلین

    مراسلے:
    5,832
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Daring
  11. محمد امین

    محمد امین لائبریرین

    مراسلے:
    9,452
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Flirty
  12. مزمل شیخ بسمل

    مزمل شیخ بسمل محفلین

    مراسلے:
    3,523
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
  13. مزمل شیخ بسمل

    مزمل شیخ بسمل محفلین

    مراسلے:
    3,523
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
  14. مزمل شیخ بسمل

    مزمل شیخ بسمل محفلین

    مراسلے:
    3,523
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
  15. سلمان دانش جی

    سلمان دانش جی معطل

    مراسلے:
    398
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    لیکن قیامت اس وقت برپا ہوتی ہے جب مرد معشوق اور عورت عاشق بن جائے۔ کیونکہ عورت کی محبت سچی اور جذبے جنون کی حد سے آگے مظبوط تر ہوتے ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. سیما آفتاب

    سیما آفتاب محفلین

    مراسلے:
    16
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اب میرا دل بلیوں اچھلنے لگا...اور میں سرجھاڑ منہ پھاڑ ...بغلیں بجاتا ہوا اپنے استاد صاحب کے پاس پہنچا... اور یہ خوش خبری سنائی... تاکہ ان کی آنکھیں ٹھنڈی ہوجائیں...لیکن میں نے منہ کی کھائی...اور بڑے سنگین حالات سے دوچار ہوا... کیوں کہ محاورہ سنتے ہی وہ آگ بگولہ ہوگئے... سونے پر سہاگا یہ کہ ایک زناٹے دار طمانچہ میرے رخسارِ غم گسار پر جڑدیا۔
    اب تو میری حالت اور پتلی ہوگئی... پیروں تلے زمین نکل گئی...رہے سہے اوسان بھی خطا ہوگئے...کہ کاٹو تو بدن میں لہو نہیں... اور پھر...ایک دم میرا پارہ چڑھ گیا...اور میرا غصہ آسمان سے باتیں کرنے لگا...کہ میں نے سردھڑ کی بازی لگاکر اور خون پسینا ایک کرکے جوکام کیا تھا... اس میں بھی مجھے ڈانٹ ڈپٹ اور مارکٹائی کا سامنا کرنا پڑا... ایسی کی تیسی ایسے محاورات کی...اگر میرا بس چلتا تو ان محاورات کو نیست ونابود ہی کردیتا... ان کے گلستان کو تہ وبالا کردیتا... ان کے چمن کو زیرو زبر کردیتا... اور پھر میں کافی دیر تک پیچ و تاب کھاتا رہا... بڑی بڑی ہانکتا رہا... یہاں تک کہ استاد صاحب کے صبر کا پیمانہ لبریز ہوگیا...اور پھر انہوں نے مجھے خوب سنائی ...کہ تم بڑے طوطا چشم ہو... ماننے کی صلاحیت تم میں صفر بٹا صفر ہے... اور نہ ماننا تمھارے اندر سولہ آنے فٹ ہے... دس میں سے صرف ایک محاورہ یاد کیا ...وہ بھی اونٹ کے منہ میں زیرہ... اور آٹے میں نمک کے برابر... پھر اس پر قیامت یہ کہ... الٹا چور کوتوال کو ڈانٹے ...کہ ایک تو چوری اوپر سے سینہ زوری...حد ہوگئی کہ صرف تین لفظی محاورہ یاد کیا... وہ بھی نقطے سے... خالی!!!!
    کیا آپ بتا سکتے ہیں کہ وہ کون سا محاورہ تھا؟؟؟

    کچھ دل سے
     
  17. محمد امین

    محمد امین لائبریرین

    مراسلے:
    9,452
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Flirty
    اگلے مہینے پاکستان کرکٹ ٹیم انگلستان فتح کرنے جا رہی ہے۔ طبلِ جنگ کاکول میں بج چکا ہے اور پیادہ دستوں کی guerilla جنگ کے لیے تربیت جاری ہے کہ انگلستان کے نائٹ کلبوں میں شبخون مار سکیں۔ فوج کے اسکول اوف فزیکل ٹریننگ نے یہ بیڑا اٹھایا ہے۔

    مزید پڑھیں۔۔۔
    http://ameensdiary.blogspot.co.uk/2016/05/blog-post.html
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  18. عبداللہ محمد

    عبداللہ محمد مدیر

    مراسلے:
    10,305
    جھنڈا:
    Pakistan
  19. ربیع م

    ربیع م محفلین

    مراسلے:
    3,569
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Lonely
  20. عبداللہ محمد

    عبداللہ محمد مدیر

    مراسلے:
    10,305
    جھنڈا:
    Pakistan
    حوالہ دیں بندہ شکر گزار ہوگا۔
    اور اگر نہ ملا تو؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر