1. اردو محفل سالگرہ شانزدہم

    اردو محفل کی سولہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

کوئی ایک اچھی سی بات جو آج آپ نے پڑھی شئیر کیجیے

زنیرہ عقیل نے 'کھیل ہی کھیل میں' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جون 9, 2018

  1. زنیرہ عقیل

    زنیرہ عقیل محفلین

    مراسلے:
    396
    کوئی ایک اچھی سی بات جو آج آپ نے پڑھی شئیر کیجیے
    ----------------------------------------------------------
    ﺟﺐ ﺳﺎﺋﻨﺲ ﮐﯿﻮﮞ
    ﺍﻭﺭ ﮐﯿﺎ
    ﮐﯽ ﺗﺸﺮﯾﺢ ﮐﺮﺗﮯ ﮐﺮﺗﮯ
    ﮐﯿﺴﮯ
    ﭘﺮ ﺁﮐﺮ ﺭﮎ ﺟﺎﺗﯽ ﮨﮯ ﺗﻮ ﻭﮨﺎﮞ ﺳﮯ
    ﺍﻥ ﺍﻟﻠﮧ ﻋﻠﯽ ﮐﻞ ﺷﺊ ﻗﺪﯾﺮ
    ﺷﺮﻭﻉ ﮨﻮﺗﺎ ﮬﮯ ​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  2. شمشاد خان

    شمشاد خان محفلین

    مراسلے:
    1,807
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    سب سے زیادہ اچھی نیکی کسی بھوکے کے مُنہ میں لقمہ ڈالنا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. شمشاد خان

    شمشاد خان محفلین

    مراسلے:
    1,807
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    جب آنسو نکل آتے ہیں ناں، تو ان میں صرف نمک اور پانی ہی نہیں ہوتا۔
    ان میں ماضی کی تکلیفیں، حاک کا دکھ درد، اپنوح کے ستم، چاہنے والوں کے بے اعتباری، کبھی نہ لوٹ کر آنے ولاوں کا غم، وعدوں کی پامالی اور نہ جانے کیا کیا احساسات اور جذبات چھپے ہوتے ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  4. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    سرشارؔ وہ کیوں کر کہتے ہیں ہم قوم و وطن کے خادم ہیں
    ڈالے نہ گئے جو زنداں میں جکڑے نہ گئے جو سلاسل میں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    زندگی کی خوبیوں کے بارے میں سوچیں بجائے ان چیزوں کے بارے میں جو ہماری ہاتھ میں نہیں، اور جن کا ہمارے پاس کوئی حل بھی نہیں۔
     
  6. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    حضورپاک صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی ذات رحمت للعالمین ہے، آپ صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم تمام جہانوں کے لئے رحمت بن کر تشریف لائے۔ آپ صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی مدحت و ثناء خوانی جہاں مسلمانوں کا شعار رہی ہے، وہیں کچھ ایسے غیر مسلم شعراء بھی ہیں جنہوں نے آپ صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی شان میں بہت عمدہ نعتیہ کلام لکھے۔ خصوصاً بھارتی شاعر کنور مہندر سنگھ بیدی سحر نے اس سلسلے میں لافانی اشعار حضور پاک صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی شان میں کہے،

    ہم کسی دین سے ہوں صاحبِ کردار تو ہیں
    ہم ثناء خوانِ شہء حیدرِ کرار تو ہیں
    نام لیوا ہیں محمد کے پرستار تو ہیں
    یعنی مجبور پئے احمدِ مختار تو ہیں


    عشق ہو جائے کسی سے کوئی چارہ تو نہیں
    صرف مسلم کا محمد صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم پہ اجارہ تو نہیں
     
  7. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    برگِ درختانِ سبز ، در نظر ہوشیار
    ہر ورقے دفتریست ز معرفت کردگار (سعدیؒ)
    اے خدا! میں اس بے سوزوگداز زندگی سے عاجز آگیا ہوں یا تو مجھے وہ آنکھ عطا کر جو تجھے دیکھ سکے یا پھر اس ''جانِ بے دیدار'' کو مجھ سے واپس لے لے۔ تو نے مجھے عقل دی ہے، تو عشق (جنون) کی دولت بھی عطا فرما تاکہ میں مقصدِ حیات میں کامیاب ہو سکوں۔
    اقبالؒ ، علم اور عشق کا مختصر موازنہ کرتے ہیں۔ کہتے ہیں کہ علم کا مقام ذہن یا سوچ بچار ہے لیکن عشق کا مقام قلب ہے ، جو ہمیشہ بیدار رہتا ہے۔
    ''قلب لانیام'' وہ قلب جو کبھی نہ سوئے اس لئے اقبالؒ دل کی بیداری کی طرف اشارہ کرتے ہیں کیونکہ جب عاشق '' واذکرواللہ کثیراً'' پر عمل کرتا ہے تو ذکرِ الٰہی کی برکت بلکہ تاثیر سے اس کا دل جاری ہو جاتا ہے یعنی خواہ وہ کسی حال میں ہو، اس کا دل ذکرِ الٰہی میں مشغول رہتا ہے۔ اس کو صوفیاء اپنی اصطلاح میں ''دل کا جاری ہو جانا'' کہتے ہیں اور اقبالؒ اس کو دل کے زندہ ہوجانے سے تعبیر کرتے ہیں۔ چنانچہ کہتے ہیں:
    دلِ مردہ دل نہیں ہے اسے زندہ کر دوبارہ
    کہ یہی ہے امتوں کے مرضِ کہن کا چارہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  8. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اسلام کا تصور علم
    علم کی تعریف
    فنی اعتبار سے علم کا مادہ ’’ع ل م،، ہے جس کے معنی ’’جاننا،، کے ہیں گویا :

    اَلْعِلْمُ اِدْرَاکُ الشَّيئِ بِحَقِيْقَتِه.

    ’’علم کسی شے کو اس کی حقیقت کے حوالے سے جان لینے کا نام ہے۔،،

    یعنی علم ایک ایسا ذہنی قضیہ اور تصور ہے جو عالم خارج میں موجود کسی حقیقت کو جان لینے سے عبارت ہے۔ علم کا اطلاق ایسے قضیے پر ہوتا ہے جو محکوم اور محکوم بہ پر مشتمل ہو اور جس کے متوازی خارج میں ایسی ہی حقیقت موجود ہو جیسی قضیے میں بیان ہوئی ہو، لہذا ہم کہہ سکتے ہیں کہ ہر قضیہ علم نہیں ہو سکتا، وہی قضیہ علم کہلائے گا جو کلی اور وجوبی ہو اور موجود خارج کے حوالے سے صحت کا مصداق ہو۔

    ارکان علم
    مندرجہ بالا تعریف کے مطابق علم کے ارکان کی تعداد چار ہے۔

    1۔ ناظر (OBSERVER)
    جو شخص علم کے بارے میں جاننا چاہتا ہے وہ ناظر کہلاتا ہے۔ یہ امتیاز اور درجہ اشرف المخلوقات یعنی حضرت انسان کو حاصل ہے۔ اسے معروف اصطلاح میں طالب علم بھی کہتے ہیں، یعنی کچھ جاننے کی جستجو میں رہنے والا طالب علم کہلاتا ہے۔ علم ایک بحر بیکراں ہے۔ کوئی شخص کلی علم حاصل کر لینے کا دعویٰ نہیں کر سکتا البتہ علم کا طالب جب کچھ نہ کچھ جان لے تو اسے عالم کہا جا سکتا ہے۔

    2۔ منظور (OBJECT)[L : 3]
    منظور وہ شے ہے جسے جانا جا رہا ہو۔ اس سے مراد کوئی حقیقت (Reality) ہوسکتی ہے، خواہ یہ عقلی وجود رکھتی ہو یا حسی۔ یہ کائنات رنگ و بو اور اس کے مادی اور غیر مادی موجودات و حقائق منظور کا درجہ رکھتے ہیں۔

    3۔ استعداد نظر (OBSERVING CAPABILITY)
    اس سے مراد یہ ہے کہ ناظر جو مشاہدہ (Observation) کر رہا ہے اس میں کسی چیز کو جاننے کی صلاحیت اور اور استعداد کس قدر موجود ہے۔ علم کا یہ تیسرا رکن ہے۔ اگر منظور (وہ حقیقت جس کے بارے میں جانا جا رہا ہو) حسی نوعیت کی ہو تو ناظر کو حواس خمسہ کی استعداد حاصل ہونی چاہئے تاکہ وہ حواس خمسہ سے اس چیز کو اپنے حیطہ ادراک میں لے سکے۔ اس کے برعکس اگر منظور (Object) عقلی نوعیت کا ہو تو ناظر میں استعداد عقلی کا ہونا ضروری ہے۔
     
  9. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اسلام میں حسن اخلاق کی اہمیت و فضیلت

    حسن اخلاق کی قرآن و حدیث میں بڑی اہمیت و فضیلت وارد ہوئی ہے۔ابودرداءؓ سے روایت ہے کہ نبی ﷺ نے فرمایا کہ بروز قیامت ترازو میں سب سے زیادہ وزنی بہتر اخلاق ہوگا۔ اچھے اخلاق کے حاملین کے لئے بشارت بھی ہے۔ اچھا اخلاق ایک ایسا ہتھیار ہے جس سے انسان لوگوں کے دلوں پر حکمرانی کرسکتاہے۔ آپ ﷺ نے پورے دین کی خدمت اپنے اسی اخلاق کریمانہ سے کی ہے۔ آپﷺ پرظلم وستم کے پہاڑ توڑے گئے ۔ پتھر مار کرسر سے پاؤ ں تک لہو لہان کردیاگیا ، گلے میں رسی ڈال مارنے کی کوشش کی گئی لیکن آپ ﷺ نے اخلاق فاضلہ کا دامن نہیں چھوڑا۔ آپ ﷺ جس طرح امام الانبیاء و امام الرسل تھے، اسی طرح آپ ﷺ اخلاق وکردار کے سب سے افضل اور بلند معیار پر فائز تھے۔ آپ نے اپنے اخلاق کریمانہ کے ذریعہ پوری دنیا کو فتح کیا۔ حضرت عائشہ صدیقہؓ سے آپ ﷺ کے اخلاق کے بارے میں پوچھا گیا تو آپ نے بتایاکہ نبی کریم ﷺ کا اخلاق قرآن تھا۔ خادم رسول انس بن مالکؓ کہتے ہیں کہ میں نے بنی کریم ﷺ کی10برسوں تک خدمت کی آپ نے مجھے کبھی اف تک نہیں کہا۔اور نہ میرے کسی کام کے بارے میں کہا کہ تم نے ایسا کیوں کیا؟ اور جو کام میں نے نہیں کیا اس کے بارے میں کبھی یہ نہیں کہا کہ تم نے یہ کیوں نہیں کیا؟ عبداللہ بن عمروبن عاصؓکا بیان ہے کہ آپ نہ تو فحش گوئی کرنے والے تھے اور نہ فحش گوئی کو پسند کرتے تھے۔آپ لوگوں سے فرمایا کرتے تھے کہ تم میں سب سے زیادہ اچھا وہ ہے جس کے اخلاق اچھے ہیں۔یہی وجہ ہے کہ آپ ﷺ ہمیشہ لوگوں کے ساتھ شریفانہ اخلاق سے پیش آتے تھے اور نہایت بلند مقام ومرتبہ کے باوجود تواضع اور بردباری کا مظاہرہ کرتے تھے۔ آپ ﷺ جب کسی سے ملتے تو خندہ پیشانی سے مسکراتے ہوئے ملتے۔ بڑوں کی عزت اور چھوٹوں پر شفقت فرماتے، یتیموں اور غریبوں کے ساتھ مل کر بیٹھتے، گھر والوں کے ساتھ حسن سلوک فرماتے اور لوگوں کے ساتھ رحم دلی اور جود وسخا کا معاملہ فرماتے تھے۔
     
  10. تبسم

    تبسم محفلین

    مراسلے:
    9,230
    موڈ:
    Chatty
    زندگی میں قسم قدم اور قلم
    بہت سونچ سمجھ کر اُتھانا چاہیے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. احسن جاوید

    احسن جاوید محفلین

    مراسلے:
    208
    وقت کی لہریں کبھی کبھی انسان کو اس جزیرے پر لا پھینکتی ہیں جہاں اس کے پاس سب کچھ موجود ہوتا ہے جس کی اس نے کبھی آرزو کی تھی مگر اپنا آپ نہیں ہوتا! اپنے آپ اور سب کچھ کا in phase ہونا کتنا ضروری ہے اس کی حقیقت اس جزیرے کے سوا کون کھول سکتا تھا. تبھی تو انسان کو اندازہ ہوتا ہے کہ وہ وقت میں کتنا پیچھے رہ گیا. وقت ہی تو وہ سب کچھ تھا جو اس کہانی میں اہم تھا، باقی سب کچھ وہم تھا! اہم کسی کے نام ہو گیا کہ یہ فیز کے چکر کے سوا کچھ نہ تھا، وہم ہمارے حصے میں آگیا!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  12. تبسم

    تبسم محفلین

    مراسلے:
    9,230
    موڈ:
    Chatty
    ملتا بہت کچھ ہے مگر ہم گنتی صرف اس کی کرتے ہیں جو نہیں ملتا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  13. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    ہزاروں میل کا سفر پہلے قدم سے شروع ہوتا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اپنے رب سے اپنی ضرورتوں یا خواہشوں کو مانگنا غلط نہیں ہے مگر اسکی عطا کردہ نعمتوں کا صدق دل سے شکر کرنا ہمیں اپنے خالق سے ایک زندہ تعلق و محبت فراہم کرتا ہے جو از خود ایک بہت بڑی عطا ہے...
    یاد رکھیں ناشُکری کے سوراخ لالچ کے پیالے کو کبھی بھرنے نہیں دیتے ، یااللّہ ہر حال تیرا شُکر بجا لانے کی توفیق عطا فرما۔
    الحمداللّہ
    الحمداللّہ کثیرا
    الحمداللّہ رب العالمین
    الحمداللّہ علی کل حال
    الحمداللّہ
    آمین آمین آمین یا کریم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  15. ام عبدالوھاب

    ام عبدالوھاب محفلین

    مراسلے:
    2,586
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    آپ نماز اور قرآن کے
    ذکر کی طرف کبھی
    خود نہیں جاتے
    آپکو چن لیا جاتا ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • متفق متفق × 1
  16. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,496
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    قائد اعظم کا ہم پر احسان ہے

    شکریہ جناب قائد بے حساب شکریہ آپکی سالگرہ کے موقعہ پہ اظہارِ تشکر


    کم لوگ ایسے ہوتے ہیں جو تاریخ کا دھارا موڑ دیتے ہیں اور ان میں سے اور بھی بہت کم لوگ ہوتے ہیں جو دنیا کا نقشہ بدل دیتے ہیں، انہی میں سے قائداعظم محمد علی جناح بھی ہیں۔برصغیر کے مسلمانوں کو قائداعظم محمد علی جناح کی شکل میں ایسا رہبر میسر آیا جس نے اپنی عقل و دانشمندی سے مسلمانوں کو آزاد مملکت دی جس میں ہم الحمدللہ آزادی کی سانس لے رہے ہیں۔
    ہمارا فرض ہے کہ پاکستان کو قائداعظم محمد علی جناح کے افکار کے مطابق عمل کرکے ترقی کے سفر پر گامزن ہوا جائے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  17. تبسم

    تبسم محفلین

    مراسلے:
    9,230
    موڈ:
    Chatty
    ﺧﻠﻮﺹ ﮐﯽ ﺟﻨﮓ ﻟﮍﺗﮯ ﻟﮍﺗﮯ ﺍﮐﺜﺮ ﺑﻘﺎ ﮐﮯ ﻟﺌﮯ ﻣﻨﺎﻓﻘﺖ ﮐﮯ ﺳﯿﻨﮯ ﭘﮧ ﺳﺮ ﺭﮐﮫ ﮐﺮ ﺧﻮﺩ ﮐﻮ ﺩﻻﺳﮧ ﺩﯾﻨﺎ ﭘﮍﺗﺎ ﮨﮯ ۔۔۔ ﺍﻧﺪﺭ ﮐﺘﻨﯽ ﮨﯽ ﺗﻮﮌ ﭘﮭﻮﮌ ﮐﯿﻮﮞ ﻧﮧ ﮨﻮ ﺑﺎﮨﺮ ﭼﭩﺎﻥ ﺑﻦ ﮐﺮ ﺧﻮﺩ ﮐﻮ ﺛﺎﺑﺖ ﮐﺮﻧﺎ ﮨﻮﺗﺎ ﮨﮯ ﮐﮧ ﺍﮮ ﺑﭽﮭﮍﮮ ﻟﻮﮔﻮ ۔۔ ! ﮨﻢ ﻧﮩﯿﮟ ﺑﮑﮭﺮﮮ ﮨﻢ ﻧﮩﯿﮟ ﺑﮑﮭﺮﮮ ﮮ ﮮ ۔۔۔
    ﺟﺒﮑﮧ ﺍﻧﺪﺭ ﮐﯽ ﺻﺪﺍ ﺍﻭﺭ ﮨﯽ ﮨﻮﺗﯽ ﮨﮯ ﮐﮧ ﺍﮮ ﺑﭽﮭﮍﮮ ﻟﻮﮔﻮ ۔۔ ! ﮨﻢ ﺍﺟﮍ ﮔﺌﮯ ﮨﯿﮟ ﺍﺟﮍ ﮔﺌﮯ ﮨﯿﮟ ۔۔۔
    ﻣﻨﺎﻓﻘﺖ ﺁﺧﺮﯼ ﺳﮩﺎﺭﺍ ﮨﮯ ﺷﺎﺥ ﺳﮯ ﺑﮑﮭﺮﮮ ﭘﺘﻮﮞ ﮐﺎ ﮐﮧ ﺧﻮﺩ ﮐﻮ ﮨﺮﺍ ﺛﺎﺑﺖ ﮐﺮﯾﮟ ﻭﺭﻧﮧ ﺧﺰﺍﮞ ﺳﺎﺭﺍ ﺷﺠﺮ ﺍﺟﺎﮌ ﺩﮮ ﮔﯽ ۔۔ !
    ﺍﺯ ﻗﻠﻢ :: ﺑﯿﻨﺎ ﺑﻨﺖ ﺁﺩﻡ
    ﺍﻧﺘﺨﺎﺏ :: ﻋﻤﯿﺮﮦ ﺍﺣﻤﺪ
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  18. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    یہ فیس بک سے کاپی کر کے یہاں لگا دیا ہے ناں۔

    اس کا فونٹ تو تبدیل کر لیا کرو۔
     
    آخری تدوین: ‏دسمبر 29, 2020
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  19. تبسم

    تبسم محفلین

    مراسلے:
    9,230
    موڈ:
    Chatty
    جہان سے لائی اس کا بتا نا تھا نا اس لیے نہیں کیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  20. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    کہاں سے لائی تھیں؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر