کاش ایسا کبھی ہو مرے دیس میں

فیضان قیصر نے 'اِصلاحِ سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مارچ 27, 2019

  1. فیضان قیصر

    فیضان قیصر محفلین

    مراسلے:
    184
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    کاش ایسا کبھی ہو مرے دیس میں
    لوگ نکلیں گھروں سے یہ کہتے ہوئے
    آج اپنے مسیحاؤں کے واسطے
    ہم ہمارے گھروں سے نکل ائے ہیں
    اور سڑکوں پہ بیٹھے مسیحاؤں سے
    لوگ بولیں سنو
    ہم تمھاری جگہ دھرنا دینگے یہاں
    اسپتالوں میں تم لوٹ جاؤ وہاں
    منتظر ہیں تمھارے کئی غم زدہ
    ہیں ملول و پریشاں، دکھی، بے خطا
    صبحِ نو کا انھیں جاکے پیغام دو
    جاؤ کارِ مسیحائی انجام دو.
     
    مدیر کی آخری تدوین: ‏اکتوبر 4, 2019
    • زبردست زبردست × 2
  2. خواجہ سگ پرست

    خواجہ سگ پرست محفلین

    مراسلے:
    42
    جھنڈا:
    Canada
    موڈ:
    Doubtful
    فیضان صاحب، آپ کی اس نظم کا مرکزی خیال اور لب و لہجہ بہت اچھا ہے۔ مجھے یہ نظم بہت پسند آئی۔

    ایک آدھ جگہ معمولی سی تبدیلی سے یہ شیشے سے ہیرے میں تبدیل ہو سکتی ہے، اگر کوئ استاد اس پر توجہ دیں تو۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • متفق متفق × 1
  3. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    7,609
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    فیضان قیصر بھائی خوبصورت نظم ہے ۔ یہ نظم بحور سے آزاد نثری شاعری ہرگز نہیں بلکہ باقاعدہ آزاد نظم ہے۔ ہم اسے اصلاح سخن کے زمرے میں منتقل کر رہے ہیں۔
     
    آخری تدوین: ‏اکتوبر 4, 2019
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  4. فیضان قیصر

    فیضان قیصر محفلین

    مراسلے:
    184
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
  5. فیضان قیصر

    فیضان قیصر محفلین

    مراسلے:
    184
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    رہنمائی فرمانے کا بے حد شکریہ -
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  6. فیضان قیصر

    فیضان قیصر محفلین

    مراسلے:
    184
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    پسند کرنے کا اور رہنمائی کرنے کا بے حد شکریہ
     
  7. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,621
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    اچھی نظم ہے شاید کہیں ڈاکٹروں کی ہڑتال کے موضوع پر ۔
    'ہم ہمارے گھروں' اچھا نہیں، 'ہم اپنے گھروں' درست محاورہ ہوتا ہے
    دوسری خامی یہ لگی
    ہم تمھاری جگہ دھرنا دینگے یہاں
    دھرنا کے الف کا اسقاط گوارا نہیں، ترتیب بدل دیں
    دیں گے دھرنا یہاں
    باقی ٹھیک ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  8. فیضان قیصر

    فیضان قیصر محفلین

    مراسلے:
    184
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    بہت شکریہ سر- جی یہ پاکستان میں ڈاکٹرز کی ہرتال کے پس منظر میں ہی لکھی گئی تھی- آپ کی نشاندھی کے مطابق تبدیلیاں کر دی ہیں -
     
  9. فیضان قیصر

    فیضان قیصر محفلین

    مراسلے:
    184
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    الف عین اس طرح ٹھیک ہوجائے گا نا سر
    ہم بھی اپنے گھروں سے نکل آئے ہیں
     
  10. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,621
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    مجھے بھی یہی مصرع سوجھا تھا لیکن 'بھی' بھرتی کا لگا۔ شاید 'جو' ، 'بھی' کی بہ نسبت بہتر لگے
     
    • متفق متفق × 1

اس صفحے کی تشہیر