پتا ہے پیزا کہاں ہے ہماری قسمت میں کبھی

عرفان سعید نے 'مزاحیہ شاعری' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 4, 2019

  1. عرفان سعید

    عرفان سعید محفلین

    مراسلے:
    6,702
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Mellow
    چار سال پہلے جب شاعری کرنے کا دورہ پڑا تو ایک صبح برش کرتے ہوئے کچھ اشعار ہو گئے۔ اب انہیں موزوں کرکے پیش کر رہا ہوں۔ زیادہ نوک پلک سنوارنے کا تردد نہیں کیا۔

    پتا ہے پیزا کہاں ہے ہماری قسمت میں کبھی
    ایک دو روپے والے تندور کی روٹی ہی سہی

    مٹن کڑاہی و نہاری کوفتے اور حلیم
    اور نہیں تو چکن کی اک ٹانگ کی بوٹی ہی سہی

    ہمیشہ رہتی وہ حسینہ فیس بُک پر ہی مگن
    کبھی تو اک پیار بھری نگاہ کھوٹی ہی سہی

    غیروں پہ تو ہیں پھینکتی آپ حُسن کے تیر اور
    ہم پہ اگر سوٹا نہیں تو کوئی سوٹی ہی سہی

    یہ کھلی کالی زُلفیں کچھ جچتی نہیں ہیں آپ کو
    تو بعد از مالشِ تیل ایک چوٹی ہی سہی

    وہ نازک اندام حسینہ خوابوں تک رہ گئی ہے
    گر نہیں دبلی پتلی کوئی تو موٹی ہی سہی

    ۔۔۔ عرفان ۔۔۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 6
  2. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی لائبریرین

    مراسلے:
    18,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    واہ واہ ،
    کیا بات ہے ،
    بہت شاندار پرمزاح ۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. عرفان سعید

    عرفان سعید محفلین

    مراسلے:
    6,702
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Mellow
    حوصلہ افزائی کا بہت شکریہ عدنان بھائی!
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر