1. اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں فراخدلانہ تعاون پر احباب کا بے حد شکریہ نیز ہدف کی تکمیل پر مبارکباد۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    $500.00
    اعلان ختم کریں

مجھ سے اونچا ترا قد ہے، حد ہے۔۔۔ اطیب جازل

محمد بلال اعظم نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 11, 2016

  1. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,219
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    مجھ سے اونچا ترا قد ہے، حد ہے
    پھر بھی سینے میں حسد ہے، حد ہے

    میرے تو لفظ بھی کوڑی کے نہیں
    تیرا نقطہ بھی سند ہے، حد ہے

    تیری ہر بات ہے سر آنکھوں پر
    میری ہر بات ہی رد ہے، حد ہے

    عشق میری ہی تمنا تو نہیں
    تیری نیت بھی تو بد ہے، حد ہے

    زندگی کو ہے ضرورت میری
    اور ضرورت بھی اشد ہے، حد ہے

    بے تحاشہ ہیں ستارے لیکن
    چاند بس ایک عدد ہے، حد ہے

    اشک آنکھوں سے یہ کہہ کر نکلا
    یہ تیرے ضبط کی حد ہے؟ حد ہے

    روکتے کیوں نہیں اس کو جازل
    یہ جو سانسوں کی رسد ہے، حد ہے

    اطیب جازل
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
    • زبردست زبردست × 3
  2. فرقان احمد

    فرقان احمد محفلین

    مراسلے:
    8,779
  3. حسن محمود جماعتی

    حسن محمود جماعتی محفلین

    مراسلے:
    2,491
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    عمدہ شراکت۔ زبردست۔ کچھ ہی عرصہ پہلے اس کلام کے چند اشعار سے آشنائی ہوئی تھی آج مکمل پڑھنے کو مل گیا۔
     

اس صفحے کی تشہیر