محسن نقوی غزل: ذہن میں صورتِ گماں ٹھہری

محمد تابش صدیقی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 12, 2017

  1. محمد تابش صدیقی

    محمد تابش صدیقی منتظم

    مراسلے:
    25,114
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    ذہن میں صورتِ گماں ٹھہری
    وہ نظر اس طرح کہاں ٹھہری؟

    ہم نے جوبے خودی میں کہہ ڈالی
    بات وہ زیبِ داستاں ٹھہری

    پھول مانگو تو زخم دیتے ہیں
    اب یہی رسمِ دوستاں ٹھہری

    چاند کو دیکھ کر وہ یاد آئے
    چاندنی میری رازداں ٹھہری

    خواہشوں میں بکھر گئی محسنؔ
    دوستی جنسِ رائیگاں ٹھہری

    ٭٭٭
    محسن نقوی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1

اس صفحے کی تشہیر