سومنات کا مندر

عرفان سعید نے 'مزاحیہ شاعری' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اکتوبر 9, 2018

  1. عرفان سعید

    عرفان سعید محفلین

    مراسلے:
    6,702
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Mellow
    سومنات کا مندر

    پوچھا جو مندر اک سومناتی تھا وہ کس نے توڑا
    وہ بولا، اللہ کی قسم میں نے نہیں اس نے توڑا


    سن کر جواب ایسا نادر و شاذ میں تو تھا حیراں
    میں نے کہا تو طالب علم ہے یا پھر کالا گھوڑا

    جب سب سنائی میں نے کہانی وہاں کے ٹیچر کو
    کہنے لگے یہ سب سے زیادہ یہاں پر ہے چوڑا

    مندر کا گرنا آخر کیوں اپنے دل پر لیتے ہیں
    چائے پئیں، نوکر میرا سیمنٹ لینے ہے دوڑا

    کوئی نہ چارہ تھا ہیڈ ٹیچر کو بتلایا قصہ
    کر کے طلب ٹیچر کو کچھ اس لہجے میں تھا جھنجھوڑا

    میں جانتا ہوں مندر گرا ، چیز گرنے والی تھی
    ٹوٹا جو مندر تم نے کیوں پھر نہیں اس کو جوڑا

    اب میری حد سے باہر تھی ایسی حماقت کی باتیں
    میں نے کہا، جاؤ جاہلو! میں نے تم سب کو چھوڑا
    ۔۔۔ عرفان ۔۔۔​
     
    • پر مزاح پر مزاح × 4
  2. سردار محمد نعیم

    سردار محمد نعیم محفلین

    مراسلے:
    1,841
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Aggressive
    مقطع کاتو جواب ہی نہیں واہ واہ:LOL:
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. عرفان سعید

    عرفان سعید محفلین

    مراسلے:
    6,702
    جھنڈا:
    Finland
    موڈ:
    Mellow
    بہت شکریہ سردار صاحب
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر