1. اردو محفل سالگرہ پانزدہم

    اردو محفل کی پندرہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

اکبر الہ آبادی :::::دِل زِیست سے بیزار ہے،معلُوم نہیں کیوں::::::::::Akbar -Allahabadi

طارق شاہ نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 24, 2020

  1. طارق شاہ

    طارق شاہ محفلین

    مراسلے:
    10,645
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm

    غزل
    اکبؔر الٰہ آبادی

    دِل زِیست سے بیزار ہے،معلُوم نہیں کیوں
    سینے پہ نَفَس بار ہے، معلُوم نہیں کیوں

    اِقرارِ وَفا یار نے ہر اِک سے کِیا ہے
    مُجھ سے ہی بس اِنکار ہے، معلُوم نہیں کیوں

    ہنگامۂ محشر کا تو مقصوُد ہے معلُوم
    دہلی میں یہ دربار ہے، معلوم نہیں کیوں

    جِس سے دِلِ رنجُور کو ،پہونچی ہے اذِیّت
    پِھر اُس کا طَلَب گار ہے، معلُوم نہیں کیوں

    اے گُل! تِرا نظّارہ دِل آویز ہے، لیکن
    پہلُو میں تِرے خار ہے،معلُوم نہیں کیوں

    افلاس میں مستی تو مُجھے خوش نہیں آتی
    ساقی کو یہ اِسرار ہے، معلُوم نہیں کیوں

    انداز تو عُشّاق کےپائے نہیں جاتے
    اکبؔر جگر افگار ہے، معلُوم نہیں کیوں

    جینے پہ تو، جان اہلِ جہاں دیتے ہیں اکبؔر!
    پِھر یہ تُجھے دُشوار ہے ، معلُوم نہیں کیوں

    اکبؔر الٰہ آبادی

     

اس صفحے کی تشہیر