ترکی زبان و ادب سے متعلق سوالات

محمد شعیب نے 'تعلیم و تدریس' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ستمبر 18, 2014

  1. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    [​IMG]
    کافی عرصہ سے ترکی زبان سیکھنے کا شوق تھا، اب حسان بھائی کی معاونت سے سیکھنے کا آغاز کردیا ہے۔ :) :)
    اس زبان کو سیکھنے میں جو دشواری یا سوالات سامنے آئیں گے، ان شاء اللہ اس دھاگہ میں پوچھیں گے۔ حسان بھائی سے خصوصی توجہ کی درخواست ہے :) :)
     
    آخری تدوین: ‏ستمبر 18, 2014
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • زبردست زبردست × 1
  2. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    حسان بھائی، ذرا یہ بتائیے کہ ترکی زبان میں کسی بھی زبان کے نام کے آخر میں ca کیوں لکھا ہوتا ہے؟ جیسے urduca
    :) :)
     
  3. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    نیز یہ بتائیں کہ آفندیم، کردیشیم (kardeşim) وغیرہ میں آئی ایم آخر میں کس چیز کا لگتا ہے؟ اس کا مطلب میرا ہوتا ہے کیا؟ برادرم کی طرح؟ :) :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. محمد علم اللہ

    محمد علم اللہ محفلین

    مراسلے:
    5,820
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Daring
    آپ پرسنلی سیکھ رہے یا کوئی دھاگہ بھی ہے ۔
    اگر دھاگہ ہے تو شیر کریں کلاس کی اسٹرنتھ بڑھے ۔
    مجھ سمیت کچھ اور اسٹوڈنٹ بھی شرکت کرنا پسند کریں گے ۔
     
    • متفق متفق × 4
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. عثمان سیال

    عثمان سیال محفلین

    مراسلے:
    25
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Brooding
    آپ کس طرح سیکھ رہے ہیں؟ کسی ویب سائٹ سے یا کسی کتاب سے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    حسان بھائی کے ہی مشورہ پر اس کتاب سے سیکھنے کی کوشش جاری ہے، اگر آپ بھی ساتھ شامل ہورہے ہیں تو موسٹ ویلکم :) :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    ذاتی طور پر سیکھ رہے ہیں، اوپر کتاب کا حوالہ دیا ہے :) :)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  8. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    اور ابھی ویکی کتب پر یہ کتاب ملی ہے، تاہم جیسا کہ اوپر اشارہ موجود ہے کہ یہ کتاب پچیس فیصد مکمل ہے لیکن ہمیں مفید لگ رہی ہے۔ کیونکہ شروع کے بنیادی اسباق سو فیصد مکمل ہیں۔ :) :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. محمد علم اللہ

    محمد علم اللہ محفلین

    مراسلے:
    5,820
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Daring
    ایسے ایک راز کی بات بتاوں میں نے جامعہ میں ٹرکش سرٹیفیکیٹ میں ایڈمیشن لیا ہے لیکن ابھی سمجھ کچھ نہیں آ رہا :(
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  10. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    وہاں کیا پڑھ رہے آپ؟ کہاں تک پہونچے ہیں؟ :) :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. محمد علم اللہ

    محمد علم اللہ محفلین

    مراسلے:
    5,820
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Daring
  12. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    15,049
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    یہ ایک اسم ساز لاحقہ ہے جو قوموں یا ملکوں کے نام کے آخر میں آ کر اُن کی زبان کے معنی دیتا ہے۔ مثلاً Türkçe, Farsçaوغیرہ۔

    اس لاحقے کی چار شکلیں ہیں: ca, ce, ça, çe
    جو اسماء p, ç, t, k, f, h, s, ş پر ختم ہوتے ہوں، اُن کے بعد لاحقہ چ/ç سے شروع ہوتا ہے۔
    جن اسماء کے آخری مصوت A I O U ہوں، اُن کے بعد لاحقے کا مصوت بھی a ہوتا ہے۔
    ان قواعد کے بارے میں مزید پڑھیے:
    http://www.turkishclass.com/turkish_lesson_63
    http://www.turkishlanguage.co.uk/vh1.htm
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  13. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    15,049
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    جی، جس طرح فارسی میں 'م' متکلم کا ضمیرِ ملکیِ متصل ہے، اُسی طرح ترکی میں 'یم' استعمال ہوتا ہے۔

    اس لاحقے کی پانچ ممکنہ شکلیں ہو سکتی ہیں:
    ۱) جن الفاظ کے آخری مصوت e یا i ہوں، وہاں اس کی شکل 'im' ہو گی۔
    dişim = میرا دانت biletim = میرا ٹکٹ kardeşim = میرا بھائی
    ۲) جن الفاظ کے آخری مصوت a یا ı ہوں، وہاں اس کی شکل 'ım' ہو گی۔
    atım = میرا گھوڑا kızım = میری لڑکی، میری بیٹی
    ۳) جن الفاظ کے آخری مصوت ö یا ü ہوں، وہاں اس کی شکل 'üm' ہو گی:
    gözüm = میری آنکھ gülüm = میرا پھول
    ۴) جن الفاظ کے آخری مصوت o یا u ہوں، وہاں اس کی شکل 'um' ہو گی:
    dostum = میرا دوست، میرا یار
    ۵) جو الفاظ مصوت ہی پر ختم ہو رہے ہوں، وہاں صرف 'm' آئے گا:
    abla = بڑی بہن ablam = میری بڑی بہن

    ترکی زبان کے ان مصوتی ہم آہنگی (vowel harmony) کے قواعد سے ڈرنے یا گھبرانے کی ضرورت نہیں۔ کچھ ہی دنوں میں یہ آپ کی یادداشت کا حصہ بن جائیں گے۔ :)
     
    آخری تدوین: ‏ستمبر 19, 2014
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
  14. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    یہ مصوتی ہم آہنگی کیا ہوتی ہے، کچھ اس پر بھی روشنی ڈالیں :) :)
     
  15. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    15,049
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ترکی زبان میں لاحقوں کی شکلیں اس بات پر انحصار کرتی ہیں کہ کسی اسم کا آخری مصوت کون سا ہے۔ ترکی زبان کے اسی قاعدے کو مصوتی ہم آہنگی کہا جاتا ہے۔ اوپر پچھلے جواب میں اس کی کچھ مثالیں دیکھی جا سکتی ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    حسان بھائی، ایک بات بتائیں کہ ترکی k کا تلفظ ہمیشہ ق سے ہی ہوتا ہے یا ک سے بھی؟ جیسے kitap
    نیز ğ کا تلفظ کیا ہوتا ہے؟ عربی کی کتابوں میں غین لکھا ہوا ہے، کیا یہ واقعی درست ہے؟ :) :)
     
  17. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    15,049
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    مملکتِ ترکی میں استعمال ہونے والی جدید ترکی استانبول کے لہجے پر مبنی ہے۔ استانبول میں ق اور ک کے درمیان لوگوں نے فرق کرنا ترک کر دیا تھا اور دونوں کو 'ک' ہی پڑھتے تھے، اس لیے لاطینی خط میں دونوں آوازوں کی علامت کے طور پر k ہی کو منتخب کیا گیا۔ لہٰذا آج ترکی میں قلم اور کتاب دونوں k سے لکھے اور پڑھے جاتے ہیں۔

    اناطولیائی ترکی میں 'غ' کی آواز مفقود ہو چکی ہے۔ اس آواز کی نمائندگی کرنے والا حرف ğ اب محض اپنے سے پہلے آنے والے مصوت کو لمبا کر دیتا ہے۔
    مثلاً dağ (=پہاڑ) کو 'داء' پڑھا جائے گا، یعنی آخر میں 'غ' کی آواز لانے کے بجائے الف کو کشیدہ کر دیا جائے گا۔

    البتہ آذربائجانی خطے میں dağ کو داغ ہی پڑھا اور لکھا جاتا ہے کیونکہ اُن کے ترکی لہجے میں غ کی آواز باقی ہے۔

    نیز، ترکی میں کوئی لفظ ğ حرف سے شروع نہیں ہو سکتا، اس لیے غ سے شروع ہونے والی عربی کے الفاظ g سے لکھے اور پڑھے جاتے ہیں۔
    مثلاً غیرت = gayret
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  18. محمد شعیب

    محمد شعیب محفلین

    مراسلے:
    1,806
    موڈ:
    Busy
    انتہائی قیمتی معلومات فراہم کرنے کے لیے شکریہ حسان بھائی :) :)
     
  19. اریب آغا

    اریب آغا محفلین

    مراسلے:
    763
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    جمہوریہ آذربائیجان کی زبانِ ترکی اور ایرانی آذربائیجان کی ترکی میں کوئی قابلِ ذکر فرق ہے؟
     
  20. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    15,049
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    معیاری زبان میں زیادہ فرق نہیں ہے۔ ایک اہم تفاوت یہ ہے کہ جمہوریۂ آذربائجان کے مردُم کی زبان پر روسی الفاظ اور اصطلاحیں موجود ہوتی ہیں، جبکہ ایرانی آذربائجان والوں کی زبان میں فارسی الفاظ و تراکیب کا استعمال زیادہ ہے، کیونکہ ایرانی آذربائجان میں تدریس و تعلیم کی زبان فارسی ہی ہے۔ گفتاری سطح پر مختلف علاقوں کے لہجوں میں چند فرق موجود ہیں۔ مثلاً اہلِ تبریز گفتاری لہجے میں عموماً علامتِ مصدر 'ماخ' استعمال کرتے ہیں، مثلاً 'گلماخ' (آنا)۔۔۔ لیکن معیاری زبان میں لکھتے بولتے وقت وہ بھی 'گلمک' ہی بروئے کار لاتے ہیں۔ بہ ہر حال، چند نامانوس فارسی الفاظ سے صرفِ نظر کر لیا جائے تو جمہوریۂ آذربائجان والوں کو ایرانی آذربائجان والوں کی زبان سمجھنے میں کوئی دشواری نہیں ہوتی، بلکہ مجھے تو اکثر دونوں اطراف کے مردُم کی زبان سننے میں یکساں ہی لگتی ہے۔
    ایرانی آذربائجان کے اکثر تُرکی زبانان اپنے گفتاری لہجے میں 'گ' کا تلفظ 'ج' کی طرح، اور 'ک' کا تلفظ 'چ' کی طرح کرتے ہیں۔ یہ چیز جمہوریۂ آذربائجان کے گویندوں میں بھی نظر آئی ہیں، لیکن شاید یہ طرزِ تلفظ ایرانی آذربائجان میں زیادہ رائج ہے۔

    پس نوشت: کلاسیکی تُرکی ادبیات کا سب سے زیادہ آسانی اور خوبی کے ساتھ مطالعہ ایرانی آذربائجان کے مردُم کر سکتے ہیں، کیونکہ وہ تُرکی کے ساتھ فارسی سے بھی بخوبی واقف ہوتے ہیں۔
     
    آخری تدوین: ‏جون 14, 2017
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3

اس صفحے کی تشہیر