اقبال (بچوں کے لیے) ماں کا خواب ( ماخُوذ )

طارق شاہ نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ستمبر 17, 2013

  1. طارق شاہ

    طارق شاہ محفلین

    مراسلے:
    10,631
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm

    ماں کا خواب

    علامہ اقبال
    (ماخو ذ)
    بچوں کے لیے

    میں سوئی جو اِک شب تو دیکھا یہ خواب
    بڑھا اور جس سے مِرا اِضطراب

    یہ دیکھا، کہ میں جا رہی ہوں کہیں
    اندھیرا ہے اور راہ مِلتی نہیں

    لرزتا تھا ڈر سے مِرا بال بال
    قدم کا تھا دہشت سے اُٹھنا محال

    جو کچھ حوصلہ پا کے آگے بڑھی
    تو دیکھا قطار ایک لڑکوں کی تھی

    زمرد سی پوشاک پہنے ہوئے
    دِیے سب کے ہاتھوں میں جلتے ہوئے

    وہ چپ چاپ تھے آگے پیچھے رَواں
    خُدا جانے، جانا تھا اُن کو کہاں

    اِسی سوچ میں تھی کہ، میرا پسر
    مجھے اُس جماعت میں آیا نظر

    وہ پیچھے تھا اور تیز چلتا نہ تھا
    دِیا اُس کے ہاتھوں میں جلتا نہ تھا

    کہا میں نے پہچان کر ، میری جاں!
    مجھے چھوڑ کر آ گئے تم کہاں

    جُدائی میں رہتی ہُوں میں بے قرار
    پروتی ہوں ہر روز اشکوں کے ہار

    نہ پروا ہماری ذرا تم نے کی
    گئے چھوڑ ، اچھی وفا تم نے کی

    جو بچے نے دیکھا مِرا پیچ و تاب
    دِیا اُس نے منہ پھیر کر یُوں جواب

    رُلاتی ہے تُجھ کو جُدائی مِری
    نہیں اِس میں کچُھ بھی بَھلائی مِری

    یہ کہہ کر وہ کچُھ دیر تک چپ رہا
    دِیا پھر دِکھا کر یہ کہنے لگا

    سمجھتی ہے تُو، ہو گیا کیا اِسے؟
    تِرے آنسوؤں نے بُجھایا اِسے

    علامہ اقبال
     
    • زبردست زبردست × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  2. Aqibimtiaz786

    Aqibimtiaz786 محفلین

    مراسلے:
    6
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    کیا بات ہے طارق بھائی عمدہ شیئرنگ۔۔۔۔:)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    800
    اس میں بچوں کے لیے کیا پیغام ہے؟
     
  4. نور وجدان

    نور وجدان مدیر

    مراسلے:
    5,321
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Asleep
    واقعتا بچوں کے لیے اس میں کیا پیغام.ہے؟
     
  5. رباب واسطی

    رباب واسطی محفلین

    مراسلے:
    1,504
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Chatty
    بچوں کے لیئے نہیں، ہم بڑوں کے لیئے پیغام ہے
    جس کا وقت آگیا اسے اس دنیا سے جانا ہے، کسی عزیز کا گذر جانا اس کے لواحقین کے لیئے واقعی سانحہ ہوتا ہے، جس پہ گذرتی ہے صرف وہی جانتا ہے کہ کسی کا اس دنیا سے چلے جانے کا کتنا دکھ ہوتا ہے، انسان جذباتی ہے ایسے موقعوں پر رونا آہی جاتا ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ اب جانے والے کے لیئے صرف رونا ہی جاری رکھا جائے بلکہ اس کے ایصالِ ثواب کے لیئے نیک اعمال کیئے جائیں تاکہ اس کے ہاتھ کا دیا روشن رہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر