1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $453.00
    اعلان ختم کریں

برائے اصلاح - ہم شہر بھر میں خود کو، بدنام دیکھتے ہیں

فلسفی نے 'اِصلاحِ سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 9, 2019

  1. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    سر الف عین اور دیگر احباب سے اصلاح کی گذارش ہے۔

    ہم شہر بھر میں خود کو، بدنام دیکھتے ہیں
    پتھر کو پوجنے کا، انجام دیکھتے ہیں

    عاشق کی خوبیوں سے، صرفِ نظر کریں گے
    اہلِ خرد جنوں کا، الزام دیکھتے ہیں

    مشکل میں دوسروں کی، امداد کے بجائے
    کم ظرف لوگ اپنا، آرام دیکھتے ہیں

    کوشش تھی دردِ دل کو، ظاہر نہ ہونے دیں گے
    ہم آئینے میں خود کو، ناکام دیکھتے ہیں

    دل بے وفا کو دے کر، خاموش بیٹھ کر ہم
    اب زندگی کا اپنی، انجام دیکھتے ہیں​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  2. منذر رضا

    منذر رضا محفلین

    مراسلے:
    327
    جھنڈا:
    Pakistan
    حضرت فلسفی صاحب خوب غزل کہی۔ تاہم دوسرا شعر سمجھ نہیں آ سکا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  3. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    بہت شکریہ منذر بھائی۔
    کہنا یہ چاہ رہا ہوں کہ عشق والوں میں اگر کوئی خوبی بھی ہے تو اہل خرد اس کو نظر انداز کردیتے ہیں کہ ان کے مطابق عاشق پر جنوں کا الزام ہوتا ہے یعنی عقل سے ماوراء۔
     
    آخری تدوین: ‏جولائی 9, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  4. منذر رضا

    منذر رضا محفلین

    مراسلے:
    327
    جھنڈا:
    Pakistan
    خوب فلسفی صاحب۔ خیال خوب ہے۔ اور کہا بھی خوب۔ دراصل بندہ ہی کچھ کج فہم واقع ہوا ہے، جس کی وجہ سے آپ کو زحمت دی گئی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,523
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    دوسرا شعر واقعی واضح نہیں، الفاظ بدل کر واضح کرو
    اب زندگی کا اپنی، انجام دیکھتے ہیں
    کیا سیدھابہتر نہیں
    اب اپنی زندگی کا انجام دیکھتے ہیں
    باقی درست ہے غزل
    درمیان میں کوما کی ضرورت نہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    بہت شکریہ سر۔

    متبادل سوچتا ہوں۔
     
  7. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    سر یہ متبادل ٹھیک رہے گا؟

    اہلِ خرد سے مخفی عاشق کی خوبیاں ہیں
    وہ عشق پر جنوں کا الزام دیکھتے ہیں
     
    آخری تدوین: ‏جولائی 10, 2019
  8. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    منذر رضا بھائی غلط املا کی نشاندہی کے لیے شکریہ
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  9. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,523
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    در اصل الزام دیکھنا محاورے کے خلاف ہے، اگر یہی قافیہ لانا ہو تو مزید بہتر طریقے سے لانا چاہیے۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  10. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    جی بہتر ہے سر، ابھی تو اور کچھ سوجھ نہیں رہا، لیکن اس کو مزید بہتر کر کے پیش کروں گا۔
     
  11. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    سر الف عین ، "الزام" والے مصرعے کا کوئی متبادل تو سمجھ میں نہیں آیا۔ لیکن ایک حسن مطلع اور ایک مزید شعر کے بارے میں آپ کی رائے درکار ہے۔


    وقتِ اجل کو اپنے دو گام دیکھتے ہیں
    بارش میں پھر سے بھیگی جب شام دیکھتے ہیں

    نظریں اٹھا کے زاہد اس کو نہ دیکھ پایا
    ہر روز جو تماشہ ہم عام دیکھتے ہیں​
     
  12. انس معین

    انس معین محفلین

    مراسلے:
    212
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    واہ بہت خوب
    عمدہ غزل کہی ہے جناب ۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  13. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,523
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    دوسرا شعر تو ٹھیک ہے مگر حسن مطلع واضح نہیں ہوا۔ بارش یا شام کا موت سے تعلق؟
    اگر دور از کار ربط قبول کر بھی لیا جائے تو 'پھر سے بھیگی جب' اچھا نہیں لگتا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. میم الف

    میم الف محفلین

    مراسلے:
    223
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    آپ اِتنا کیوں دیکھتے ہیں؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 3
  15. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    کوئی دیکھے نہ دیکھے "عظیم" تو دیکھے گا :p
     
  16. فلسفی

    فلسفی محفلین

    مراسلے:
    2,583
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    شکریہ سر

    حسن مطلع والے شعر کو درست کرنے کی کوشش کرتا ہوں۔
     

اس صفحے کی تشہیر