احمدی اقلیت اور ہمارے علما کا رویہ

جاسم محمد نے 'اسلام اور عصر حاضر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 16, 2020

  1. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,384
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اگر آپ کی اس منطق کو مان لیا جائے تو مرزا قادیانی جس نے نبوت کا دعوہ کیا اس کے جانشین مرزا ناصر سے اسی دلیل کی بنیاد پر ہی مناظرہ کیا گیا اور اسی مناظرے کے تحت وہ کافر قرار پائے۔ اور پوری دنیا کو دکھا دیا گیا کہ مرزا قادیانی لاہوری گروپ تمام وغیرہ کافر ہیں۔ جب جانشین دلیل نہ دے سکا اورکافر قرار دیا گیا تو یہ کھیل ختم ہوچکا ہے۔ اور مفتی محمود کے بقول اب قادیانی مذہب ایک مردہ لاش ہے جس میں کبھی بھی جان نہیں آئیگی۔
     
    • غمناک غمناک × 1
  2. محمد سعد

    محمد سعد محفلین

    مراسلے:
    2,885
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    بعض اوقات مردے کو بھی ہلا جلا کر لوگوں کو دکھانے کی ضرورت تو بہرحال پڑتی ہے کہ یہ واقعی مردہ ہی ہے۔ مفتی محمود صاحب اور دیگر علماء نے یہی تو کیا تھا۔ خیر، اگر ابھی تک آپ کو میری بات کی سمجھ نہیں آئی تو یہیں پر بات روک لیتا ہوں۔ بعد میں کبھی اس پر سوچ لیں گے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  3. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,384
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    سوچ لیں۔ ہم بھی آپ کو محفل میں ہی کہیں نہ کہیں مٹر گشت کرتے نظر آئیں گے۔
     
  4. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    26,631
    یعنی جانشین سے دلیل مانگنے والے جید علما کرام کافر قرار نہیں پائے؟
    ویسے علما کرام قادیانیوں کو اس اسمبلی والے مناظرہ سے بہت پہلے ہی کافر قرار دے چکے تھے۔ یوں وہاں دوبارہ ٹرائل کی قطعی ضرورت نہ تھی۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  5. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,384
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بلکل صحیح قادیانی کافر قرار پہلے سے دیئے گئے تھے۔ لیکن پاکستان میں قانونی طور پر 1974 میں ۷ ستمبر کو کافر قرار پائے۔ اور یوں قادیانیوں کے جھوٹے مذہب کے تابوت پر آئین پاکستان کی 295 بی آخری کیل ثابت ہوئی۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  6. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    26,631
    یعنی قادیانی خلیفہ کی جرح کرنے والے علما کرام اسمبلی کاروائی سے قبل ہی قادیانیوں سے متعلق ایک حتمی رائے قائم کر چکے تھے۔ یوں اسمبلی والی کاروائی عوام کو دکھانے کیلئے محض خانہ پوری کیلئے تھی۔ اگر قادیانی خلیفہ اس میں شامل نہ ہوتا تو بھی علما کرام وہی فیصلہ کرتے جو جرح کے بعد کیا۔
     
  7. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,384
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    قادیانی خلیفہ نہ صرف شامل ہوئے بلکہ اپنے جھوٹے مذہب کا دفاع کرنے میں بھی ناکام رہے ۔ اور مسلسل 13 دن تک ان کو موقع دیا گیا جس کے بعد آخر کار قادیانیوں کو آئین پاکستان کے تحت بھی کافر قرار دیا گیا۔
     
  8. فاروق سرور خان

    فاروق سرور خان محفلین

    مراسلے:
    3,200
    جھنڈا:
    UnitedStates
    موڈ:
    Breezy
    انصاف کی بات ہے کہ قادیانی غیر مسلم ہیں اپنے عقائید کی وجہ سے۔
    کچھ لوگوں کو اس کی ضرورت ہے۔ ان کو کافر قرار دینے کی ضرورت اس لئے ہے کہ ، قادیانیوں کو تعلیم، نوکری، اور کاروبار سے ، کافر ہونے کے بہانے محروم رکھا جائے

    آج جو مسلمان بچے ہیں ان کے بارے میں انصاف پر بنی یہ وڈیو دیکھیں، بھارت میں تو مسلمان اس کیٹیگری میں شامل ہی نہیں ہیں جہاں وہ مساوی حقوق کے حقدار ہی نہیں
    اس میں کیا خرابی ہے؟ قادیانیوں کو پاکستان میں غیر مسلم قرار دے کر نوکری، تعلیم اور کاروبار سے محروم کرنا اگر درست ہے تو پھربھارت، یورپ ، امریکہ ، جاپان میں مسلمانوں کو تعلیم، نوکری ، کاروبار سے محروم کرنا کیونکر غلط ہو سکتا ہے؟

    اسی کو کہتے ہیں استحصال ، قانونی استحصال
    کیا وجہ ہے کہ سنی، بہانوں بہانوں سے 20 فی صد زکواۃ ادا نہیں کرتے پھر بھی مسلمان تصور کئے جاتے ہیں؟

     
    • زبردست زبردست × 1
    • متفق متفق × 1
  9. احسن جاوید

    احسن جاوید محفلین

    مراسلے:
    208
    مجھے تو یہ انصاف سے زیادہ "تحریک انصاف" کی بات لگتی ہے۔ دیکھ لیجیے گا کہیں یو ٹرن نہ لینا پڑ جائے۔
     
  10. فہد مقصود

    فہد مقصود محفلین

    مراسلے:
    330
    جناب! محترم مفتی محمود صاحب کا مناظرہ میں نے متنازعہ نہیں بنایا ہے!!! آپ کا نظریہ متنازعہ بنا رہا ہے اور میرا سوال آپ سے اسی حوالے سے ہے لیکن آپ نے جواب دینے کے بجائے الٹا مجھ پر الزام لگا ڈالا ہے جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ آپ کے پاس علمی دلیل موجود نہیں ہے! اوریہ بات یہاں کے محترم اراکین اور قارئین کو صاف سمجھ بھی آجائے گی اور آپ کی بد دیانتی بھی ان پر آشکار ہو جائے گی کیونکہ سب عقل بھی رکھتے ہیں اور ما شاء اللہ تعلیم یافتہ بھی ہیں!

    جہاں تک قرآن کے فیصلے کو رد کرنے کی بات ہے میں نے عقیدہ ختمِ نبوت پر بات ہی نہیں کی ہے۔ آپ کی کوشش اس حوالے سے میرے نظریہ اور ایمان کو مشکوک بنا کر پیش کرنا ہے لیکن آپ شاید واقف نہیں ہیں کہ میرا مقصد عقیدہ توحید اور عقیدہ ختم نبوت میں کی گئی بد عنوانیوں کی نشاندہی کرنا رہا ہے اور میں یہاں بھی اس محفل میں یہی کام الحمدللہ کرتا آیا ہوں۔ اب یہ بد عنوانی چاہے کسی بڑے سے بڑے عالم نے ہی کیوں نہ کی ہو میں اسے اپنے مسلمان بہن بھائیوں کے سامنے لانے سے نہیں گھبراتا ہوں کیونکہ میرے لئے خدائے رب العزت کے احکامات کی اہمیت کسی بھی قسم کی بد عنوانی سے بڑھ کر ہے جیسا کہ اس لڑی میں میرے اس جواب سے ظاہر ہے۔

    میں چاہوں گا کہ آپ بھی ان بدعنوانیوں کا گہرائی سے مطالعہ فرمائیں اور اپنی معلومات میں اضافہ فرمائیں

    احمدی اقلیت اور ہمارے علما کا رویہ

    کفریہ عقائد

    اس کے علاوہ بہت کچھ ہے لیکن آپ کے لئے ابھی اتنا ہی کافی ہے!

    جب آپ مندرجہ بالا دھاگوں کا مطالعہ فرما لیں تو میرے اس سوال کا جواب دینا بالکل بھی نہ بھولئے گا "کیا ایسے علماء اور ان کی تعلیمات جو کہ عقیدہ توحید اور عقیدہ ختمِ نبوت کو نقصان پہنچاتی ہیں یا ان عقائد کے خلاف ہیں، ان کی غلطیوں کو کیا آپ غلط کہنا چاہیں گے؟؟؟"

    کیا آپ کے اندر اتنی ہمت ہے کہ آپ خدائے رب العزت اور رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی خاطرغلط کو غلط کہہ سکیں؟؟؟
     
    آخری تدوین: ‏جنوری 7, 2021
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,384
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    عقیدہ ختم نبوت کو سمجھنے کا فرق ہے آپ کے اور میرے نظریے میں۔
    میرے نزدیک اگر کوئی عقیدہ ختم نبوت پر جامع ایمان رکھتا ہے تو وہ دلیل دلیل کے کھیل کا رد کرے گا۔ مسیلمہ کذاب سے خلیفہ اول سیدنا ابوبکر صدیق رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے دلیل نہیں مانگی تھی۔بلکہ اس کو کیفر کردار تک پہنچایا گیا اور اس میں 12 سو کے قریب صحابہ کرام شہید ہوگئے تھے۔ تو اندازہ کریں کہ جب دعویدار سے ہی دلیل نہیں مانگی گئی تو ایک ایسا جھوٹا شخص جس کو کافر قرار دیا گیا ہے اور اس کے مرنے ایک صدی بعد اس کے ماننے والوں سے دلیل کی کوئی تُک بنتی ہے؟ اور ان لوگوں کی عقل کا کیا کہنا جو عقیدہ ختم نبوت پر ایمان رکھنے کے باوجود ان ماننے والوں کے حق میں ’’دلیل کے حق میں‘‘ دلیل دلیل کی رٹ لگائے اپنے تجزیے پیش کر رہے ہیں۔

    میں آپ کے دلیل کے کھیل کو ہی رد کرتا ہوں اسی لئے دلیل کی طرف آتا ہی نہیں۔ اور نہ ہی دلیل پیش کر رہا ہوں۔ موت اٹل ہے۔ عنقریب بعض لوگوں پر دنیا میں نہیں تو مرنے کے بعد ضرور حقیقت واضح ہوجائیگی۔ اور ان میں سے بعض کے سر سے پانی گذر چکا ہوگا۔

    جیسا کہ آپ عقیدہ ختم نبوت پر کامل ایمان رکھتے ہیں تو اب کامل ایمان رکھنے کے بعد آپ کیساتھ بحث دلیل وغیرہ کی کوئی تُک نہیں بنتی۔ خوش رہیں اور اللہ آپ کو سلامت رکھے اور ہم سب کا خاتمہ بالایمان کرے۔
     
    • مضحکہ خیز مضحکہ خیز × 1
  12. فاروق سرور خان

    فاروق سرور خان محفلین

    مراسلے:
    3,200
    جھنڈا:
    UnitedStates
    موڈ:
    Breezy
    میں قادیانی نہیں اور رسول اکرم محمد صلی اللہ علیہ وسلم کو آخری رسول مانتا ہوں۔ اور اس طرح ختم نبوت پر یقین رکھتا ہوں

    اب بات کرتے ہیں عقائید کی، تو اگر مسلمان کا عقیدہ ہے کہ جو بھی مسلمان کے عقیدے سے اختلاف رکھے گا تو اس کی سزا موت ہے تو کیا وجہ ہے کہ یہ حق غیر مسلم کو نا حاصل ہو۔

    اگر انصاف یہ ہے کہ عقیدے کا اختلاف ، قتل کا حق دیتا ہے تو کیا وجہ ہے کہ غیر مسلموں کے ہاتھوں مسلمان کے قتل پر احتجاج کرتے ہیں؟ لیکن غیر مسلم کا قتل مسلمان کا حق سمجھتے ہیں۔

    اللہ تعالی کا فرمان قرآن حکیم کسی طور بھی اییسی نا انصافی کا حکم نہیں دیتا

    5:32 اس سبب سے ہم نے بنی اسرائیل پر لکھا کہ جس نے کسی انسان کو خون کے بدلے یا زمین میں فساد پھیلانے کے سوا کسی اور وجہ سے قتل کیا گویا اس نے تمام انسانوں کو قتل کر دیا اورجس نے کسی کو زندگی بخشی اس نے گویا تمام انسانوں کی زندگی بخشی اورہمارے رسولوں ان کے پاس کھلے حکم لا چکے ہیں پھر بھی ان میں سے بہت لوگ زمین میں زیادتیاں کرنے والے ہیں

    خون کے بدلے یا فساد کے علاوہ ہر قسم کے قتل کے خلاف ہوں اور پر احتجاج کرتا ہوں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. dxbgraphics

    dxbgraphics محفلین

    مراسلے:
    5,384
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    آپ کے ہاں عقیدے کے اختلاف پر قتل کا حق ہوتا ہوگا۔
    ہمارے ہاں ہمارے لئے حضرت ابوبکر ؓ کا مسیلمہ کذاب کی نبوت کی دعویداری کے جواب میں دلیل کی بجائے سرکوبی کرنا یہ عمل حجت ہے اورجب کہ ختم نبوت کا دعویدار ہی خود جائے پاخانہ میں مر کھپ جائے تو سو سال بعد اس کے ماننے والوں یا ماننے والوں کے ہمدردوں کے ساتھ دلیل دلیل کھیل میں کچھ نہیں رکھا۔

    صاحب نماز کے ریفرنس کے حوالے سے آپ کا ایک لڑی میں انتظار کر رہا ہوں آپ کی وہاں تشریف آوری ہمارے لئے باعث عزت و صد افتخار ہوگی۔
     

اس صفحے کی تشہیر