سعود عثمانی یہ دکھ پہلے کبھی جھیلا نہیں تھا - سعود عثمانی

چوہدری لیاقت علی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اپریل 4, 2015

  1. چوہدری لیاقت علی

    چوہدری لیاقت علی محفلین

    مراسلے:
    305
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    یہ دکھ پہلے کبھی جھیلا نہیں تھا
    اکیلا تھا مگر تنہا نہیں تھا

    ہوا سے میری گہری دوستی تھی
    میں جب تک شاخ سے ٹوٹا نہیں تھا

    محبت ایک شیشے کا شجر تھی
    گھنا تھا پیڑ پر سایا نہیں تھا

    تصور جیسی اس میں بات کب تھی
    وہ میرے پاس تھا گویا نہیں تھا

    کسی کی آنکھ سے دیکھا ہے خود کو
    برا تھا میں مگر اتنا نہیں تھا

    اجازت ہو تو اب اک بات پوچھوں
    کہ مجھ سے پیار تھا بھی ' یا نہیں تھا

    (سعود عثمانی )
     
  2. نظام الدین

    نظام الدین محفلین

    مراسلے:
    1,005
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Brooding
    بہت عمدہ جناب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر