سلیم احمد یہ خاک مرے رزق کی ضامن ہے ، امیں ہے - سلیم احمد

فرحان محمد خان نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 19, 2018

  1. فرحان محمد خان

    فرحان محمد خان محفلین

    مراسلے:
    2,138
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheeky
    یہ خاک مرے رزق کی ضامن ہے ، امیں ہے
    جس خاک کا میں رزق ہوں وہ اور کہیں ہے

    جس نے تجھے دکھ سہنے کی توفیق نہیں دی
    وہ اور کوئی شے ہے محبت تو نہیں ہے

    ٹوٹے ہوئے تاروں کی لکیریں مری یادیں
    تو بھی کوئی ٹوٹا ہوا تارا تو نہیں ہے

    یہ لمحہِ موجود ہی وہ روزِ جزا ہے
    جس پر تجھے کس درجہ یقیں تھا کہ نہیں ہے

    تو منکرِ قانونِ مکافاتِ عمل تھا
    لے دیکھ ترا عرصہِ محشر بھی نہیں ہے​
    سلیم احمد
     
    • زبردست زبردست × 1

اس صفحے کی تشہیر