یہ جو دل ہے ملال ہے اس میں ٭ راحیلؔ فاروق

محمد عدنان اکبری نقیبی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 18, 2020

  1. محمد عدنان اکبری نقیبی

    محمد عدنان اکبری نقیبی محفلین

    مراسلے:
    18,434
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    یہ جو دل ہے ملال ہے اس میں
    ایک عالم کا حال ہے اس میں

    پہلے دل میں لہو کی سرخی تھی
    اب تمھارا خیال ہے اس میں

    زندگی ایسے تھم نہیں سکتی
    وقت کی کوئی چال ہے اس میں

    ڈور سانسوں کی باندھنے والے
    سانس لینا محال ہے اس میں

    آپ کے حسن کو خدا رکھے
    آپ کا کیا کمال ہے اس میں

    ہم کو مرنے سے کوئی عار نہیں
    ہجر کا احتمال ہے اس میں

    کس نے تھوکا ہے ظرفِ ہستی پر
    زندگی کا اگال ہے اس میں

    ہاتھ سے کاسہ گر کے ٹوٹ گیا
    کوئی بھاری سوال ہے اس میں

    ہم بھی پھرتے ہیں دل لیے راحیلؔ
    ایک شیشہ ہے بال ہے اس میں

    راحیلؔ فاروق​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  2. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    22,251
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    ہمیشہ کی طرح عمدہ غزل راحیل فاروق صاحب کی!
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. لاريب اخلاص

    لاريب اخلاص محفلین

    مراسلے:
    12,865
    واہ
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  4. جا ن

    جا ن محفلین

    مراسلے:
    284
    واہ، کیا کہنے!
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر