1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $420.00
    اعلان ختم کریں
  2. اردو محفل سالگرہ چہاردہم

    اردو محفل کی یوم تاسیس کی چودہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

جون ایلیا کلام جون ایلیا

عرفان سرور نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 25, 2011

  1. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    ہے فصیلیں اٹھا رہا مجھ میں
    جانے یہ کون آ رہا مجھ میں

    جون مجھ کو جلا وطن کر کے
    وہ مرے بِن بھلا رہا مجھ میں

    مجھ سے اُس کو رہی تلاشِ امید
    سو بہت دن چھپا رہا مجھ میں

    تھا قیامت سکوت کا آشوب
    حشر سا اک بپا رہا مجھ میں

    پسِ پردہ کوئی نہ تھا پھر بھی
    ایک پردہ کھِنچا رہا مجھ میں

    مجھ میں آکے گرا تھا اک زخمی
    جانے کب تک پڑا رہا مجھ میں

    اتنا خالی تھا اندروں میرا
    کچھ دنوں تو خدا رہا مجھ میں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  2. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    بے انتہائی شیوہ ہمارا سدا سے ہے
    اک دم سے بھولنا اسے پھر ابتدا سے ہے

    یہ شام جانے کتنے ہی رشتوں کی شام ہو
    اک حزن دل میں نکہت موج صبا سے ہے

    دستِ شجر کی تحفہ رسانی ہے تا بہ دل
    اس دم ہے جو بھی دل میں مرے وہ ہوا سے ہے

    جیسے کوئی چلا بھی گیا ہو اور آئے بھی
    احساس مجھ کو کچھ یہی ہوتا فضا سے ہے

    دل کی سہولتیں ہیں عجب ، مشکلیں عجب
    ناآشنائی سی عجب اک آشنا سے ہے

    اس میں کوئی گلہ ہی روا ہے نہ گفتگو
    جو بھی یہاں کسی کا سخن ہے وہ جا سے ہے

    آئے وہ کِس ہنر سے لبوں پر کہ مجھ میں جون
    اک خامشی ہے جو مرے شورِ نوا سے ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    جو رعنائی نگاہوں کے لئے فردوسِ جلوہ ہے
    لباسِ مفلسی میں کتنی بے قیمت نظر آتی
    یہاں تو جاذبیت بھی ہے دولت ہی کی پروردہ
    یہ لڑکی فاقہ کش ہوتی تو بد صورت نظر آتی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    ہر بار میرے سامنے آتی رہی ہو تم
    ہر بار تم سے مل کے بچھڑتا رہا ہوں میں
    تم کون ہو یہ خود بھی نہیں جانتی ہو تم
    میں کون ہوں یہ خود بھی نہیں جانتا ہوں میں
    تم مجھ کو جان کر ہی پڑی ہو عذاب میں
    اور اسطرح خود اپنی سزا بن گیا ہوں میں

    تم جس زمین پر ہو میں اُس کا خدا نہیں
    پس سر بسر اذیت و آزار ہی رہو
    بیزار ہو گئی ہو بہت زندگی سے تم
    جب بس میں کچھ نہیں ہے تو بیزار ہی رہو
    تم کو یہاں کے سایہ و پرتو سے کیا غرض
    تم اپنے حق میں بیچ کی دیوار ہی رہو

    میں ابتدائے عشق سے بے مہر ہی رہا
    تم انتہائے عشق کا معیار ہی رہو
    تم خون تھوکتی ہو یہ سُن کر خوشی ہوئی
    اس رنگ اس ادا میں بھی پُر کار ہی رہو

    میں نے یہ کب کہا تھا محبت میں ہے نجات
    میں نے یہ کب کہا تھا وفادار ہی رہو
    اپنی متاعِ ناز لُٹا کر مرے لیئے
    بازارِ التفات میں نادار ہی رہو

    جب میں تمہیں نشاطِ محبت نہ دے سکا
    غم میں کبھی سکونِ رفاقت نہ دے سکا
    جب میرے سب چراغِ تمنا ہوا کے ہیں
    جب میرے سارے خواب کسی بے وفا کے ہیں
    پھر مجھ کو چاہنے کا تمہیں کوئی حق نہیں
    تنہا کراہنے کا تمہیں کوئی حق نہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    زخمِ امید بھر گیا کب کا
    قیس تو اپنے گھر گیا کب کا

    آپ اک اور نیند لے لیجئے
    قافلہ کُوچ کر گیا کب کا

    دکھ کا لمحہ ازل ابد لمحہ
    وقت کے پار اتر گیا کب کا

    اپنا منہ اب تو مت دکھاؤ مجھے
    ناصحو، میں سُدھر گیا کب کا

    نشہ ہونے کا بےطرح تھا کبھی
    پر وہ ظالم اتر گیا کب کا

    آپ اب پوچھنے کو آئے ہیں؟
    دل میری جاں، مر گیا کب کا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    کسی سے عہد و پیماں کر نہ رہیو
    تُو اس بستی میں رہیو پر نہ رہیو

    سفر کرنا ہے آخر دو پلک بیچ
    سفر لمبا ہے بے بستر نہ رہیو

    ہر اک حالت کے بیری ہیں یہ لمحے
    کسی غم کے بھروسے پر نہ رہیو

    ہمارا عمر بھر کا ساتھ ٹھیرا
    سو میرے ساتھ تُو دن بھر نہ رہیو

    بہت دشوار ہو جائے گا جینا
    یہاں تُو ذات کے اندر نہ رہیو

    سویرے ہی سے گھر آجائیو آج
    ہے روزِ واقعہ باہر نہ رہیو

    کہیں چھپ جاؤ تہ خانوں میں جا کر
    شبِ فتنہ ہے اپنے گھر نہ رہیو

    نظر پر بار ہو جاتے ہیں منظر
    جہاں رہیو وہاں اکثر نہ رہیو
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  7. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    بے قراری سی بے قراری ہے
    وصل ہے اور فراق طاری ہے

    جو گزاری نہ جا سکی ہم سے
    ہم نے وہ زندگی گزاری ہے

    بن تمہارے کبھی نہیں آئی
    کیا مری نیند بھی تمھاری ہے

    اس سے کہیو کہ دل کی گلیوں میں
    رات دن تیری انتطاری ہے

    ایک مہک سمت دل سے آئی تھی
    میں یہ سمجھا تری سواری ہے

    خوش رہے تو کہ زندگی اپنی
    عمر بھر کی امید واری ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  8. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    بزم سے جب نگار اٹھتا ہے
    میرے دل سے غبار اٹھتا ہے

    میں جو بیٹھا ہوں تو وہ خوش قامت
    دیکھ لو! بار بار اٹھتا ہے

    تیری صورت کو دیکھ کر مری جاں
    خود بخود دل میں پیار اٹھتا ہے

    اس کی گُل گشت سے روش بہ روش
    رنگ ہی رنگ یار اٹھتا ہے

    تیرے جاتے ہی اس خرابے سے
    شورِ گریہ ہزار اٹھتا ہے

    کون ہے جس کو جاں عزیز نہیں؟
    لے ترا جاں نثار اٹھتا ہے

    صف بہ صف آ کھڑے ہوئے ہیں غزال
    دشت سے خاکسار اٹھتا ہے

    ہے یہ تیشہ کہ ایک شعلہ سا
    بر سرِ کوہسار اٹھتا ہے

    کربِ تنہائی ہے وہ شے کہ خدا
    آدمی کو پکار اٹھتا ہے

    تو نے پھر کَسبِ زَر کا ذکر کیا
    کہیں ہم سے یہ بار اٹھتا ہے

    لو وہ مجبورِ شہر صحرا سے
    آج دیوانہ وار اٹھتا ہے

    اپنے ہاں تو زمانے والوں کا
    روز ہی اعتبار اٹھتا ہے

    جون اٹھتا ہے، یوں کہو، یعنی
    میر و غالب کا یار اٹھتا ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    نئی خواہش رچائی جا رہی ہے
    تیری فرقت منائی جا رہی ہے

    نبھائی تھی نہ ہم نے جانے کس سے
    کہ اب سب سے نبھائی جا رہی ہے

    یہ ہے تعمیرِ دنیا کا زمانہ
    حویلی دل کی ڈھائی جا رہی ہے

    کہاں لذت وہ سوزِ جستجو کی
    یہاں ہر چیز پائی جا رہی ہے

    سُن اے سورج جدائی موسموں کے
    میری کیاری جلائی جا رہی ہے

    بہت بدحال ہیں بستی، تیرے لوگ
    تو پھر تُو کیوں سجائی جا رہی ہے

    خوشا احوال اپنی زندگی کا
    سلیقے سے گنوائی جا رہی ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  10. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    کبھی کبھی تو بہت یاد آنے لگتے ہو
    کہ روٹھتے ہو کبھی اور منانے لگتے ہو

    گِلہ تو یہ ہے، تم آتے نہیں کبھی لیکن
    جب آتے بھی ہو تو فوراً ہی جانے لگتے ہو

    تمہاری شاعری کیا ہے بھلا، بھلا کیا ہے؟
    تم اپنے دل کی اُداسی کو گانے لگتے ہو

    سرودِ آتشِ زریں، صحنِ خاموشی
    وہ داغ ہے جسے ہر شب جلانے لگتے ہو

    سنا ہے کہکشاؤں میں روز و شب ہی نہیں
    تو پھر تم اپنی زباں کیوں جلانے لگتے ہو

    یہ بات جون تمہاری مذاق ہے کہ نہیں
    کہ جو بھی ہو، اسے تم آزمانے لگتے ہو
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy

    تشنگی نے سراب ہی لکھا
    خواب دیکھا تھا، خواب ہی لکھا

    ہم نے لکھا نصابِ تِیرہ شبی
    اور بصد آب و تاب ہی لکھا

    منشیانِ شُہود نے تا حال
    ذکرِ غیب و حِجاب ہی لکھا

    نہ رکھا ہم نے بیش و کم کا خیال
    شوق کو بے حساب ہی لکھا

    نہ لکھا اس نے کوئی بھی مکتُوب
    پھر بھی ہم نے جواب ہی لکھا

    دوستو ہم نے اپنا حال اُسے
    جب بھی لکھا، خراب ہی لکھا

    ہم نے اُس شہر دین و دولت میں
    مسخروں کو جناب ہی لکھا

    جون ایلیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  12. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    حال یہ ہے کہ خواہشِ پُرسشِ حال بھی نہیں
    اُس کو خیال بھی نہیں، اپنا خیال بھی نہیں

    اے شجرِ حیاتِ شوق، ایسی خزاں رسیدگی؟
    پوششِ برگ و گُل تو کیا، جسم پہ چھال بھی نہیں

    مُجھ میں وہ شخص ہو چکا جس کا کوئی حساب تھا
    سُود ہی کیا، زیاں ہے کیا، اس کا سوال بھی نہیں

    مست ہیں اپنے حال میں دل زدگان و دلبراں
    صُلح و سلام تو کُجا، بحث و جدال بھی نہیں

    تُو میرا حوصلہ تو دیکھ، داد تو دے کہ اب مجھے
    شوقِ کمال بھی نہیں، خوفِ زوال بھی نہیں

    جون ایلیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy

    تشنہ کامی کی سزا دو تو مزا آ جائے
    تم ہمیں زہر پلا دو تو مزا آ جائے

    میرِ محفل بنے بیٹھے ہیں بڑے ناز سے ہم
    ہمیں محفل سے اُٹھا دو تو مزا آ جائے

    تم نے اِحسان کیا تھا جو ہمیں چاہا تھا
    اب وہ اِحسان جتا دو تو مزا آ جائے

    آپنے یوسف کی زلیخا کی طرح تم بھی کبھی
    کچھ حسینوں سے ملا دو تو مزا آ جائے

    چین پڑتا ہی نہیں ہے تمھیں اب میرے بغیر
    اب تم مجھ کو گنوا دو تو مزا آ جائے

    جون ایلیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  14. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    غم ہائے روز گار میں الجھا ہوا ہوں میں
    اس پر ستم یہ ہے اسے یاد آ رہا ہوں میں

    ہاں اُس کے نام میں نے کوئی خط نہیں لکھا
    کیا اُس کو یہ لکھوں کہ لہو تھوکتا ہوں میں

    کرب غم شعور کا درماں نہیں شراب
    یہ زہر ہےاثر ہے اسے پی چکا ہوں میں

    اے وحشتو! مجھے اسی وادی میں لے چلو
    یہ کون لوگ ہیں، یہ کہاں آ گیا ہوں میں

    میں نے غم حیات میں تجھ کو بھلا دیا
    حسن وفا شعار، بہت بے وفا ہوں میں

    عشق ایک سچ تھا تجھ سے جو بولا نہیں کبھی
    عشق اب وہ جھوٹ ہے جو بہت بولتا ہوں میں

    دنیا میرے ہجوم کی آشوب گاہ ہے
    اور اپنے اس ہجوم میں تنہا کھڑا ہوں میں

    جون ایلیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  15. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,303
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    شکریہ عرفان سرور۔ لیکن یہ بتائیں کہ یہ آپ کہاں سے مواد ھاصل کر رہے ہیں؟ خود ٹائپ کر رہے ہیں اصل کتاب سے (یعنی، شاید؟) یا کسی اور سائٹ سے۔ اور کیا یہاں موجوود مواد میں کوئی غزل شامل نہیں ہے؟ اسی فورم کا چسپاں تھریڈ بھی پڑھ لیں۔ دو ای بکس میں نے بھی بنا رکھی ہیں۔ اگر کچھ مواد مزید ہوا تو ان میں بھی اضافہ کر سکتا ہوں، تمہارے حوالے سے۔ لیکن پہلے ماخذ معلوم ہو جائے تو۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  16. عرفان سرور

    عرفان سرور محفلین

    مراسلے:
    838
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    یہ سارا مواد میں ایک وب سائٹ سے اکٹھا کر رہا ہوں میں آپ کو اُس وب سائٹ
    کا لنک ان بوکس میں سینڈ کر دیتا ہوں ۔ ۔ شکریہ
     
  17. فرخ انیق

    فرخ انیق محفلین

    مراسلے:
    43
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Pensive
    زبردست۔۔۔
     
  18. ذوالفقار علی

    ذوالفقار علی محفلین

    مراسلے:
    2
    بہت خوب۔۔۔۔۔
     
  19. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,219
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
  20. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,303
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    یہ بھی کیا بہت خفیہ ہے!! ویسے اطلاعاً کہ اب تک تو مجھے مکالمہ بھی نہیں مل سکا۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1

اس صفحے کی تشہیر