1. اردو محفل سالگرہ شانزدہم

    اردو محفل کی سولہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

پاکستانی معاشرہ کی تعریف کیجئے

خرم نے 'ہمارا معاشرہ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 16, 2008

  1. خرم

    خرم محفلین

    مراسلے:
    2,294
    جی بھیا آپکی بات کافی حد تک درست ہے۔ میرا تجربہ صرف یہ رہا ہے کہ ایک ایس ایس پی کو ایک سپاہی سے کوئی غرض نہیں ہوتی اور سپاہی کی جان جاتی ہے ایس ایس پی کے سامنے جانے سے۔ اسی طرح اگر کسی بھی کلرک کی ایک انکوائری لانچ ہوجائے تو اس کی راتوں کی نیند اُڑ جاتی ہے۔ چور بہرحال چور ہوتا ہے۔ اس کے پاؤں نہیں ہوتے۔ بات صرف اتنی ہوتی ہے شائد کہ آپ کا اپنا دامن صاف ہو اور بس ایک دفعہ قدم اٹھا لیں تو پھر جھجھکیں‌نہ۔ اپنے کام سے غرض رکھیں چاہے کلرک کی نوکری چلی جائے۔ جب آگ لگتی ہے تو ہر کوئی پہلے اپنا گھر بچاتا ہے۔ بس آگ لگانا آنا چاہئے۔
     
  2. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    میں آپ کی بات سے سو فیصد متفق ہوں لیکن جہاں نیچے سے اوپر تک سب ہی ملے ہوئے ہوں تو سب ہی ایک دوسرے کو تحفظ دیتے ہیں۔ میں نے ایسے بھی کیس دیکھے ہیں کہ وزیر اعظم ہاؤس میں باقاعدہ ایک سیل کھولا گیا کہ اپنی شکایات یہاں درج کروائیں۔ کوئی آدمی شکایت درج کرواتا ہے تو جس کے خلاف شکایت کی جاتی ہے وہ درخواست اسی متعلقہ آفسر کو بھیج دی جاتی ہے۔ کہ جواب دو۔ تو کیا وہ کہے گا کہ ہاں میں غلط ہوں۔ الٹا اس آدمی کی اور سختی آ جاتی ہے کہ تم نے میرے خلاف درخواست دی تھی۔

    میں یہ نہیں کہتا کہ سارے کا سارا معاشرہ ہی اس رنگ میں رنگا ہوا ہے۔ لیکن یہ آپ بھی مانیں گے کہ اکثریت ایسی ہی ہے جس کی وجہ سے شریف آدمی اپنے جائز کاموں کے لیے بھی تکلیف اٹھاتے ہیں۔
     
  3. خرم

    خرم محفلین

    مراسلے:
    2,294
    جی بالکل۔ اکثریت نہیں انتہائی غالب اکثریت ایسی ہے کہ عام آدمی کو انصاف نہیں ملتا۔ اس میں تو کوئی شک کی بات ہی نہیں۔ اسی لئے تو میرا یہ ماننا ہے کہ ہم سب کو مل کر اس معاشرہ اور قوم کے سدھار کے لئے کوشش کرنا ہوگی اور اس کا پہلا قدم یہ ہے کہ تہیہ کریں کہ ہم خود کسی بھی خلاف قانون کام میں ملوث نہیں ہوں گے، جھوٹ نہیں بولیں گے اور کسی کو دھوکا نہیں دیں گے۔
     
  4. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    خرم بھائی ایسا تہیہ آپ وہاں کر سکتے ہیں، میں یہاں کر سکتا ہوں لیکن پاکستان میں ایسا کرنا بہت ہی مشکل ہے۔
     
  5. خرم

    خرم محفلین

    مراسلے:
    2,294
    شیطان تو ہر جگہ ایک ہی ہے نا بھیا۔ مشکل ہر جگہ ہی ہوتا ہے لیکن اس کے بغیر کام بھی تو نہیں بنتا۔ اگر تبدیلی لانی ہے تو پہلے اپنے آپ کو بھٹی میں سے گزارنا پڑے گا وگرنہ پھر گیہوں کے ساتھ میں آپ بھی گئے۔
     
  6. عمار ابن ضیا

    عمار ابن ضیا محفلین

    مراسلے:
    6,795
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    میں بھی کچھ اظہارِ خیال کرتا ہوں۔ :p ابھی فرصت ملے تو
     
  7. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اور وہ فرصت کب ملے گی؟ ابھی یہ حال ہے تو شادی کے بعد کیا ہو گا؟
     
  8. عمار ابن ضیا

    عمار ابن ضیا محفلین

    مراسلے:
    6,795
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    ہاہاہا۔۔۔۔۔ شادی کے بعد تو زیادہ فرصت ہوتی ہوگی نا؟ :lll:
    ایسا پھنسا ہوا تھا ان دنوں کہ بھول ہی گیا، اظہار خیال کس بات کرنا تھا اور کیا کرنا تھا؟ :grin:
     
  9. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    لیجیئے میں یاد دلا دیتا ہوں۔
    پاکستانی معاشرے پر کچھ لکھنا تھا آپ کو۔
     
  10. عمار ابن ضیا

    عمار ابن ضیا محفلین

    مراسلے:
    6,795
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    یہ تو یاد آگیا تھا مجھے :grin: بات یہ ہے کہ جب میں نے یہ سب کچھ پڑھا تو میرے ذہن میں کچھ نکات کلبلائے تھے، سوچا تھا کہ اس طرح لکھوں گا پر وہ پانی کا بلبلہ بن کر ختم ہوگئے۔۔۔ ابھی میں دوبارہ سے سوچتا ہوں۔ :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    انتظار کر لیتے ہیں۔ پھر میں بھی کچھ اضافہ کروں گا۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  12. علیم اللہ یوسف

    علیم اللہ یوسف محفلین

    مراسلے:
    1
    السلام علیکم و رحمۃ اللہ و برکاتہ
    محترم پیارے اور پرانے اراکین میں نیا رکن شامل ہوا ہوں۔ میں تحاریر لکھتا ہوں۔ مجھے کوئی بتائے کہ اردو محافل فورم پر تحاریر کیسے پوسٹ کرتے ہیں۔
     
  13. سیما علی

    سیما علی لائبریرین

    مراسلے:
    21,554
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    پاکستانی معاشرے میں بدقسمتی سے تعلیم کو منافع بخش کاروبار بنالیا گیا لیکن تربیت کو کوسوں دور چھوڑ دیا گیا۔ ملک میں مغربی تعلیم کے فروغ کےلیے بڑے بڑے اسکول کھول دیے گئے۔ ان بڑے اسکولوں میں بھاری بھرکم فیسیں تو وصول کی جانے لگیں لیکن طلبا کی تربیت کہیں ہوتی نظر نہیں آتی۔ یہی وجہ ہے کہ ملک کی نسل نو سماجی برائیوں اور اخلاقی گراوٹ کا شکار ہے۔

    بچوں کی شخصیت میں اخلاقی بحران اور تہذیبی اقدار کی قلت کی سب سے بڑی وجہ ان کے والدین کی غفلت ہے۔ ماں باپ اپنے مسائل میں مصروف ہیں۔ تیزی سے دوڑتی زندگی کے چیلنجز سے نمٹنے میں وہ اپنے بچوں کو فراموش کیے جارہے ہیں۔ بچوں اور والدین میں سماجی دوری کی ایک اور بڑی وجہ موبائل فون بھی بن چکا ہے۔ ہر گھر کی یہی کہانی ہے۔ ایک ہی کمرے میں والدین اور بچے اپنے اپنے موبائل فونز میں اِک دنیا سے تو رابطے میں ہوتے ہیں مگر ایک دوسرے سے لاتعلق ہوتے ہیں۔ کئی والدین اپنی مصروفیات کے باعث خود اپنے بچوں کو موبائل فون کی لت میں مبتلا کردیتے ہیں۔
    گھروں میں والدین خاص کر مائیں بچوں کی زبان اور ادب و آداب پر نظر رکھیں۔ یہ دنیا کا مانا ہوا اصول ہے کہ اگر تعلیم کے ساتھ تربیت نہ ہو تو معاشرہ ترقی کی سیڑھی نہیں چڑھ سکتا۔
     
    • زبردست زبردست × 1
  14. ضیاء حیدری

    ضیاء حیدری محفلین

    مراسلے:
    452
    تو مجھے اور میں تجھے الزام دیتا ہوں مگر
    اپنے اندر جھانکتا تو بھی نہیں میں بھی نہیں
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  15. سید عمران

    سید عمران محفلین

    مراسلے:
    16,449
    جھنڈا:
    Pakistan
    گڈ ہوگیا جی!!!
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر